Skip to main content

Full text of "Dars e Nizami Darja Sabeaa Maoqoof Alai 7th year"

See other formats


انَنترت الاگر ولد حفط 


کک (اورمس مه 
7 کے ہی كال 


| وا 271 


او اتا “ولا جح 


ا مثالا 


5 وا ۲ 0300-6882535 
9 ما ودين 0-67 


اکتا لیگ رو کی 


دہ دہ هه دك دجت 


4 درت 
نشل ال رم 


ےم سے 0 
۴3۴ ری ل 0 

تخوس حاکن ما 

۔ التإذلحبيث روک یو" 


1 | ر ااا 0300-6882535 
وار مسا عب كاه كواليتهنايطل 0300-7307166 


© 8 © 8 5 30 53 32 2 2 7ج 18 12 2ج( لی © 202 2 0 4 82 اق و 2 © 1 ها 8 3 8 5 ق 
مل تقو ن كن مول كفو ہیں 
ام ناب ا غا وي زک( آفب اوي 5 
اقادات و کل يمامح لمعتو ل دازام 
خر ت مولا نظو ران رح اڈ تھا یی 


سام وتا بیث دا رالعلوم یروا 
ضا و تيب ١‏ الوالاضغا را ال وعد 


استاز لیر بث دا راتومکیرگ يبروالا( انوا ) 
تارق اشماعت رما کرام اس بات ب طا جور ردام 
راو ۱۰۰ 


SS‏ ی ا ا 
داس رااطر ۱ 
را كف عاستا الم یت درالم یراع نموا ل مويل 03006882535 
کت ديع ناوال 
مولو ی کرم رین استاذ الد مث جار انان پل 03007307166 
۱ نے کے نے4 
> ہدارا الو مر وال مک سی رام شرا ردو پا الا ہو ج لا کت راغا عت اران . 
بل كته مید يجي روك دیف مان جل فا رو کب تات متا ن چل7دارالعلوم بل رک روالا 
ج کج رماع غر لش رعش ردوپ اد ہور جل نی اكير یرون بد ہرگ یٹ مان 
بل کت راصلا یلما ركيث ٹاورحید رآ با دج کب ما رشيد برا لپن کی بل کت رشيد يسرك رو دک 
۳ انشا لان ءاسلامآ پاواورکرا تی کے بڑےکتب ولگ وتاب ہے 


89 8 9 18 8 5 5 55 5 © 55 5 5 5 5 8 


1 
٦ 
1 
1 
1 
1 
1 
0 
1 


| اهر تن اع رالی وبا 


4 


1 
1 
0 
1 
1 
1 


ران 


ای ت 


7 


ید ك دوه اج ز 


سه سس عع سيف عم ل سس ا سس لع تت ل مسج 


الوقن ی 


ما الاسر او 


جیا 


ت س سج سج ںی یں ت س ت رل 
03 
ا 


ترما ے مصزی 
خط الا ی شن 


از برک ین قل 


اک سات با اا طاح ع ت ا ت ت ت لصح ت ہک 
1 
1 
0 
1 
1 
۱ 
اسع د عات ا ا صن ب ع ہا رہ ہہ 
1 
1 
0 
0 
1 . 
0 :مب سام عه م اه ت ت مك مام ع عاج سنت مده ت ت ت ت من مد 
1 
1 
1 
1 
1 
1 
جس SS GE SESE‏ ہیی 
1 
1 
1 
٦‏ 
0 
1 


س س سس سس با کے کس ت سس سب ہے کہ س کے س س ا سا کہ رر 


ahaa am asm 0 000:0‏ ماه ماب سان ملل mmm a‏ معت امن ده 
1 
۱ 
1 
1 
1 
4 
1 
1 
1 
1 
0 
1 
۱ 
1 


سم 
ورال 


0ہی6 ھا یا شڈ پچ عبات لإ ah‏ 


الله | 
وا2 ر 
دم 2 
كشن باء 
ول 


ہے 


تم عفان 


لي 
لل 
لعز ر ابید 


a 0‏ سس 


کر 


ال 


+ 


پام ےی سات ا ا 


خمت الر 
و رٹل 


لفظطابعدا مز وف ل ےک ق نش 


۹۸۱ 
۸۰ 


0 کک س کک کی س س ت کے س ت کک س کے ت سو ی یئیے دیج 
س س ا ا چ ا ت اا ا س ت س رر ت د ست ہے رر 


aa amer 


کی یی سس ہا n e a‏ ا 
1 


ساسا ساد جع سب دا هس هچ هس هد 


0 
3 
1 
1 
1 
3 
1 


یس ها سس شا جج سے 


اچ ا ا اج وا کو اه ہک الو وہ ہے 
نہ sci © Ga‏ ات 

أ ا ١‏ 

2د ھ تڈھ یرجھ بد تو داد ددع بي اللي تد لہ بے ا 4 2 37 


جار 


0 
1 
0 
1 
3 
1 


۲ 


7 تبئئبئبی یس تبجشششجسش 


ال 


4 ت س ت ا 


ل سس شش ل قي 


دج ہہ 


| ضرور 


تفر 


3 


که ب 1 


۱ 
1 
۳ 
1 
1 


۲ 


اما سورت قا كه 


اورا نك 


الکتاب مل 


000یس تسس سای مس سے 


emme veman awe mm ا رن رشب جج‎ 


موصو برض ونا یت 2 تفر 


1 
1 
1 
1 
1 
1 
0 

4 


+ 


تعریں 
وك 


aa 


مرب 


باع 666 شس .“پچ رڈ جج ہہ 


1 
1 


۲۳۱ 


ات 
1 
E OEE‏ 


سورہ 


اسر 11 


فا 


تحة 


اضافت 


۱ 
1 
0 


۷۳ 


EO E‏ دواد یط مه ی 


7 


اس اس دس ناماه معام ایر ںہ ہج 


0 
۳ 


ہی رت 


۰ 
- 


د ل لت بات یی تساه مات مسج بانط 
f ۱‏ 


2 


الكتاب 


0ی سسجت یڈسبس ں سبد عام مه هد 


انمساب 


| ea a a 


23 


٠‏ فان 
كر خط ررح مول منظور اك 


SOT 


لس سس ت س 


1 
3 
1 
1 
1 
1 
٤ٴ‎ 
0 
1 
1 
1 
1 
1 
1 
1 
0 
1 
0 
1 
/ 
1 
0 
1 
٦ 
1 
1 
1 


۸ 


52211 0 
سس رر 


عفر 


جات سا رڈ ری 


سر 


الفرق بنا والصويہ 


و سا وو سن عه قمع یں شیپ یی ہج ہی م ہہ ہج 


a‏ ہے پر وس 
3 5 نگ 2 


رس ضا 


5 


1.۲ ]و 


4 


اخ 
| لاس 


3 


اوی فد 


الرضا 


نز 
© © © © 15 4 © © 5 5۵ 3 65 5 


وي 


ہر ود 
ل 9000:0000 


قر لنویل ۸ و ول رایع 2 ۱ 


القظ ناوي ی فرش زاوي 
تسم شس يہ سیت سس ۵3 


1 
ند مسدب 3 چچ چو ہدیچ دج سو رد جو ا ا م 


١‏ كلت لقا اسم 


سچصچسچجسسسس۳ 
| 
1 
٦‏ 


إ۹ اجر وم 


یکچ نے سس ما شس مور 


1 


لک پرا قلا ا 
ALN as‏ 
رو یک ِ۶ UNTS‏ 
2 0س ۳ 
۱ اتم مال قلت ۰ھ 


1 
0 
0 
۲ 
4 
۱ 
1 
ات 
1 
1 


کی ایلیا ال امن اگ ١‏ ہب الث وقول مائر | Ife‏ 


ات ایا سی تست تس سے سو دس مد هت ت ا سے سد ت سح سا دع عم سا سل ا 
8« 1 


صل ال ان دس 37 أ غل استعا لک اقام | rı‏ 
نت تس مت 


E E Î‏ ہیں 


لتق متام مین 2 ٠“‏ | روا لص شن 2 


سا تست سا عا ات روت ع ست سروس اه اه ما هس 


ایس وق کی 7 27 ال ا ايان _ ۳ 


ا مل تاكن ۳ و ری طرف دا لکاجواب ۳۹ 


| کین روید 3 ١‏ ف جب رال ول عاد ىكشر ۳۸ 


اعد جح تر سد حا سرد دا اعد ات سا مو 


سے انہر ا ارت .اس 
مسر ےر اقآ یس 
مشک ۱07 ٣٢۲‏ اعت ر ل 
تن ۹ 8 رح ور نوين 2 ۱ 


EER BIA کے‎ : 


انبل تلادل 4 و میم راد ین وا ا 


سی و جرد مر دوس سس دہ E‏ 


1 SEO لعل‎ 


اس جه سا ا سك اع مس یه م 


1 


رو ہے 


اح اعت سے ت ا عبط تت تت 


یھ ہے RET‏ ہر کے ا و STAT a ٩‏ أج BI‏ 
اوه اک دوواد شاد 1 1 
ی SEE‏ ۱ 


لف 


2 
1 
SEREKE 


27 


لب 
صمح سوہ مس می و سس زد 
اس 


مت كالغوق “في 


التق ی 


يح عي ب يك 


2 ,الح اک سے 
EEE‏ 3 


2 


5-5 
37 
e 


رب الکا 


1 REE SEE E مه جح‎ 


۱ 
اپار 
0 


لرحمناور الرحيم 


عا ع شش شش اع اج ا اي 


1 


غ ن ري فک( 


االقام 


ر7 
جم 


ات یھی اورا سک یں 


۶ 
نف ENI EEE EEE‏ ود ت ںہ ےم شس شڈ 
| 
1 
0 
0 
1 
1 


کمک ستل 


ایک قانور 


7 جوا 


7 


اسم ا مج ا ا ا شس 
ی 
محر 


9 سمل مم 2 15 کر 53 3 8 85 8 3 


2 او دح سا تست 


رل 
0 1 ہد ae a‏ 
٦ا‏ 


س 


ار حمطن سكا خنتصا ص بای وج 
حنمن و رحيم کل تل كابير 


سی ا 


اماك 
1 


وي 
E:‏ يي 
is‏ 
مت ی خرن 


3 


ل مد ات صم تسه هس و ی ت مد ص ید دع سم کت ام ف اعم عسات مده 
اس عا یس ها یس یی نشج یی سس سس طحي سعط جج ت ت ت تد 


نت تكق:ب1بب1بب و ١‏ 9٦ػكپ‏ ۲ 
1 
1 
1 
4 
1 
1 
ون‌وضاطہ | 
ای مس ی ی شا یش ی ری ےج وسیوچکجدہ 0 
1 


1 
1 
او یم ا ا 


پر یہ سے مس E‏ وه سیت E‏ الم ی یخی 
ww o ۲‏ ہو ۰ 4 ۔ Zz‏ رک لك 1 2 لك ۸ 1 
کن ا رو 2 ا6ا و ا۶ط ج اه ره او او او او اه اد tili‏ 
و ہے RN‏ ۱ و و ا 
OEE E OS EEN 1‏ 2 5 2 2 2 رتا 0 گر نز را لز IIIIII‏ نز ای لیے مدع رر لے an RENEE‏ يه دع سد اه ا 
e 2 ۱‏ ا 0 ۰ x‏ 
2 ہی 


ات 
ای 
نات 


لف ر بغراو استعال 
امک نو 
مر 

لنتاعالم کا 


افظاعالمکا صرا قئال 
اذم 
اعامات پار 


نو ت م ا ت یش شس یج شش ۔ تہج 


1 
1 
موہ یتر eg‏ 


دبع مهال 


وو 


1 
352 کے سس ١‏ د عي بتاعي یوس نی سس 
7 


۲ خری وومتئو ی وجو بضعزن 
خلا رسک کار 
اورال رم 
5 


یما ا شب مس 
3 


eas 
ربك قاری‎ 


دی 
TY‏ 
aE SES‏ وہس ھچ aS‏ 


ال مقرركا جاب 


مالک یوم الد پر ی 


۱ 8 1 1 1 1٦ 1 1 1 

۱ الى اح اد | ی 

ا | اہ اں اه ۱ ۱ 

۱ ہے اث | 3 ِ ۱ ۱ پر تہ 

ےت 1 1 ۱ ھ ا 1 1 1 

۱ زلا اجه ۱ ۱ اھ ۱ 1 
اق اس ال ایا اه ات ہج جک تم اه لاہ ات | 
[ اه ال اجان ام | اد اد او ۹ا | اه ا پے جا | اش ]| 
5و اڈ زا ol‏ اج اہ ام | | و اھ پل | 1 اك | | 
ا ا 3 أ 1 1 ك٠‏ تہ إ 1 ۱ 1 1 1 ۱ ۱ 
ز و اكه ا هد | ۱ اش لک ا مت 
۱ او إو أ ا آ3 ۲۶ل اد ۲ ای دو ا ا .۱ ۱ 
۱ ہے | ۱ ۱ 1 أ ۱ ا ا 1 1 ۱ ۱ 1 ۱ 1 
i Ti “J‏ ۰1 ۱ ۱ ۱ أ ا ا 
AA E 1‏ انی یں le‏ ا ! ا 
zadan‏ ا ا ا TTT‏ ا ل ا 
۱ اک یھ ۱ ۱ ۱ 1 : أ ا ا أ 
شاع ار اع اه جرا ڑے Ei Ei EI SI‏ اع ک إل إل إلا إلا | 
کو ا 1 1 جج حور 1 أ ایت وک رہ ا e‏ 1 
٦ 1 1 1 ۲ 1 1 1 7 1 1 7 1 1 1‏ 1 0 1 1 1 
1 1 1 ۱ 1 1 1 ۱ 1 0 0 ۶ 1 1 4 


اك 


1 ۳ 1 0 1 
لماع سدم عط د سه مس مه لأس ذه نم م م عات ممه سه ذل مد ت مه ار 0720 سس سعط د سس عل عم عط سه هد د سوط سه مس ديه قم م جسن ع شد سح عع ل ص مح نه عع بلا صم سحن عي نميه سس عا عات سح ع نام طت سات بح ب بال سم ت سم عمق ساس کے - 


1 و EE‏ ا 
SN gi‏ 
د إل ا 

2 
1 7 5 
ز لا اس می 
1 ع 1 1 2 
۱ 2003 ا ۹ ۱ 4 
ا ا ۱ 
ج پوت 
0 1 ۰ 5 نے 
جو 
۱ ی ہے 
۱ وڈ ۲ 
ا 0 وڈ 
1 ۰ 
۱ ]1 ا کہ 
کو وہ 
سب ھ 
أ 1 ات 

چس سو 0 
r 4ı‏ ہم بی 
4 و ۱ r‏ 2 

6 ةذ | ده 

U 

أ مو مود ام جج جج 

۱ یه گج 

! او 3 ۶۳ 

۱ ال طا افك 
5 

ا" 1 

1 

١ 


FAY 
TAT 


0ك 


1 
1 
م مع و د سا زس ود تک کی ا 


ا ع ست ب سس 


۵ 


سام ا سس من سے سے سا عضت سو صم سد اعد سے ممما د سمه حایس دہ اع مع ےس 


۳۵ 


1 0 1 
س س سس ام ده ذم ذه ہی جال نی سے ت ذم م مطل ت عم ممم سد لہ سے سے ہے ہے ہے لہ سے لدع دس سال 


مصرالغال 


صت ا ب ا ت ھا ت ت ت م ست ا ات ت ت ا صت ت د 


1 
1 


STE 
EER 
HEISE 
۷ ات ادا‎ 

1 ۱ ۱ اما 
ور وہ 
1 ۱ ۱ ۱ مكل 
ہے ہے سے ا 
آ2 اغاغ اغِغ 

1 1 


صرا 
بیان 


ا سا ناتسد ت اس سے ول ا سساح و هس مام صلم سما سب صا ت ت طن ب 
7 2 


دان 
8 كن 
01 ےراط 
امع بد دح مم دہ مدع صن م ممم وم سے دا ددع بے سے وم سند م ممم سوه من ذه مهمه دع بک 
ربا ایا 


و 


ټل 


د 5 
لعمت 
انعمت علیهم کا صرات‌اول 


سس سس سا مس ساب مرت ع سل لف سس ی 


دب« یی طن ا 


£ ± 8 د 


سس که ست ت سے ت ساسا ھا سابع لاعت ب ت صب سے تک سات ج ما ساس ال 


ےد لد لد ت سم صم فت بل تت ت 


| 
1 

1 

1 

0 

1 

1 

4 

0 
ای 
1 

0 

1 

1 


ماف شو 


هم 


17 


6س 
تل 


ل ای سوا لكا جوب 


س ‏ ت س سو س ت ت ت ت ت ت اع سد ت ت تتت چ ساد سا ات سے اس ہے چ 


مفعول کے ب كا 


0ك 
00 089ھ 


.۰ 
ید 


rrr 


0 
يو 
1 


راء ع ار ووساذه 


عم ممم ده مناه سرام ممه ی ماه نجه عه مم ع ممه سمه ديم ل چ کہ س ت عه نا 
بسح لان ست 


1 

1 

۲ 

لبا 

× 

1 

۲ 
سس سوہ 


طف 


سس جم عا م عم ما سح لخم م م طعت سمه طعا بايا طلس هس سم عبات عام سس لس 


1 7 0 
ت س مص عق ہے نے ع ع عات سر بای ہے مه بيس متسيس مل وي بر سی ت سے با عاج ا ت س سح لے عم ت عم سد سد عم جلك ت صو سات جات 


4 
34 
4 
4 


ایا کف کے إا رہ نار لور 


سس 


ٹون پر اک نعبد وایاک نستعین 


rp. 
۳۹ 


3 :2 32 235 تاعازن دح 2 


_ اه سیم ع سے سے ید ا ا ل و 


ان ت ت ت ی ت ا ت ت ت کے ا ا ا س 
دا ممم لد ا ما لد ممه سیب ماه سمه ممه نيل ت 


م یہی ولى 
را ل 
ا 


س س نحن ات ا س ت ت جاع د سودي دس اس ا مد اتات صن لذ ت ا ا سے 


نی اول 


ام سس تسه تب مت سس هد سس هد اس و مامه چس سج ہہس = 


3 


س 


١ rrr‏ سن نی نار 
کیا 


ان معان مصاع عا مع عه ممم ا سس | 
سني م لاست عام عام صم ع م عات مامه ت ت مد ہے عنام عات طعا ع سس عل عا سے چا س 
شر 


> ڑے رس اه اه ا ا و ےہ 
لد الح له الج لو الح الح ألم 


== 


ا طسب 


سا ی ت ا ما نان ت ت عا سن سعط د ا یا ا چا 
0 


rar 


اتاک ویک 


ده ها 


8 58 هه 


اق افَاوي 
عیارل فا تره 


رت ده 
ےل 


e 2‏ 
3 ۰ 
2 
و 
3 تک 
1 9 و : 
32 
ےج جس بش () 
a!‏ اہ & 
2 لذ 18۱ 
0 5 
۱ 5 
ل 3 2 رگ ری رت ا 


هدا 


ية 


تا ریات ات ات بت ات اف 


5 سم ڈگ 
Fe‏ 


کالقوی و مل ن 
هدی سيط رت استعال زکر 


ع سام سی ت ت وبل سد می مه ت با 
1 
1 
1 
1 
1 


ببس دا سد اک 


اه 


0 
تہ ع سم م ميل ا س طا 


لزْزافاري کلت اليَضاري 


BESOIN,‏ )شع 


اقات e}‏ ۹ بت‌شازه امع 


اسان ۱ ام ١‏ مين إسْمُ الففلِ | r.4‏ 1 


سسا 0 EEE E‏ اك (EER‏ 
غير لفلضوب غانیر 1 0,21 | rir‏ ْ 
ساےہ سل س7 ما 
أغضب كي تحقيق_____._ 2 ' 1سس مسا 
7ئ ۱ E‏ 0 
شاه 


| 
ا 
1 
1 
ب لع عد عت بصعم عع ا سس سس ا جج کے ہے 
۱ 


۳۱ ا مورت فاد فطل‎ r) 


EER AE 
| 


,090 نا ہح 00 )۳۸ ١‏ 


| مخضوب وضا لک سراق 3 5 تیدا ات کلک :اق 0 1 


ہد عم ا سج جج مج سه سس سنس سنت 


اتساب 


وال رو رحو فورم کے نام 
جن کا ون شفقت اور ن دما میں مارگ تا تا 


و مول اور ناخ ر مانیوں کے باو جود موقت ےا کر لاور 


LIL LL TI 
— 


ول والرصاحب کے انال کے بعر وال دہ نکر بیس بالا 


یس ای او کت مس سب یا 


سس 


اوي ی فکدلَفْےِإليضارق ۱ ما 


98:8 © 49 08 5 5 8 0 8:18:18 8 15 5 5 :8 ها 2-0 ھ22 22 ذا ها 26.6 2 2 8 


9 ۱ ١ الاظ‎ 


و لمكا تشم ماستاذا للا ءابا الصرف واقو حر ولا رامن صاح ب زیر دم 
استازاگر یٹ جاممخالد؛نویرہپاڑئی 

بسم الله الرحمن الرحيم نحمدہ و نصلی على رسوله الكريم 

حامدا و مصلیاو مسلما. اما بعد! رب ےک می رےقائل ارام مولانا 
صاتزادہس راخ ان زاداشد فمو آم وکام مررل امع وارالطو م عيركا كي روالا بای نت 
کےساھ تماد اما زکرم جائمح مدقو ل وامنقو ل »یړال نش کے مم امو ای 7 
اوشاہ »متيال فصاحت و پاات سے داسف وا سل بر تن ومر لى ضرت مولا نا علا مجر 
نوراک رھ اللرعلیہ کے کی فوضا تلن لكل می لاس ذکا كياءوا ہے ۔ یی یکت 
متلا رال کی تفرم يل صا تز ارہ موصو ی قکراکے علاء ابا ,کی خدصت میں جکر کے 
ہیں ادراب رآ ن بی دک اع ابیکش یفک شر کےطور برای ت تیب لام 
كرا م او ربا ظا مكب كذ جن ضرمت ےن اترتا مز يد درع پا کی 5 
كيل صا تزادهموضوف صاحب دامت ماد فشكو ل اوددر ونی غ تك ام 
0892۳ ۱ 

رت صا تز او موصو نے نتر يشاوق شیک يروب تام کیا سب اور 
ال میس عيادمت ی اعر اب اورت جم گج یککھا ہے -بنده کے پا سک کی گی اھر نے امرش 
کل ول شور ےد سے ہیں جوانبوں نے وسح تل رق سا فقول کے 

شرح ناو فص انموي اشاء الد بہت اتی وار فم شرع ہےء اس میس 
بہت اتیاز ات وشو يال ہی ,مغ تيج یار تک اتام لز 2 مطا لبك ازام اورضروری سوال ت 


DIRS 5 5 6 5 5 )© 5 55 9 5 5 5 8 


أ ل ری حرف اهاري 


او ك4 
و ججوایا كا ریا نا“ قیقات ون قتا تيص فی دييكا بیان م لكات سے مین اعلی ط ر زم سکوشی 
ےن دی بسا تے' ط رآ ن ہاش دک خد یوی تک عطاركوي؛ كح مصراق باب 

حعتررت الاستاذ تمد ال عا کا رز نر رل علاء وطلياء ٹیس بت کوب تھاء ج وتاب 
پڑھاتے الک خو بت اد كر اور لور ے ءالما یبا ساتھ ج راب ھا ے فص سيم 
بادك شرل ف وب ےکر اسا ےک۲ ن می رکا لم سے ۔اور ا 
یس ن مھ یکوئی ج اخ ر مط ال کیت مایا کر بھی اوروا رهوگ پئ مال یل جوالمى 
حكن ماش بل ۷۹٭ اسا صرف ےیک روڈ شر لیف کک تام اسبائل | ری ات 
۱ پڑھاتے تے۔صرف وروت امم ارچ ے بر ہت ام 
ووی روتس دس جوصرتل‌صر یل کي کر اورک کے بعد نر تال تا مر 
كال بيكس - انا اور اقا سے لیر تفت رس لے تھے عام ور يه 


هال می ظبر ےکم ریک اور تی کے وت مطا ور 2 

تیر بيضاوى سكل م فی ر وراه أي ے۵۵ سا لل جب اح 
در صرف می تھا خضرت الا متا فت عال برس کے رن جناب اون نان تیا سب مرم جو 
درس کے صدر ان کے سحودیی عرب کے کے“ سک مو ر٣٣‏ جل ہا از ا 
اس ونت ياكشان یں میس اتا تھا 

دعاس کباش تال ای شر اوق اوراپنے در با ریش قول‌فره سي اورم سسب نات 
كاد له يناعا من ا توخا ی الم ما 

۱ ناكار گرا نی عر 
ارم یر ار مان ولیه 2 ی 
۳ رذ لجسا" اھ ۱ 


© 435 15 15 15 15 12 27 15 15 12 :18 تق 


الاو نت تارق 


4 قا ها © © 5 © 15 55 5 56 5555 14 © © 36 2355555 5 5 656 55 5 95 8:19 19 5 2 ها 
وکا ل ماستاز انعا رت ولا ناارشاداجرصاحب زی رچ رہم 
نتم وشن لی یش داي وا نیال 

بسم الله الرحمن الرحيم الحمد لله رب العالمین والعاقية للمتقین 
والمصلوة و السلام على رسوله محمد و آله وصحبه اجمعین ومن تبعهم باحسان 
من الائمة المجتهدین والمفسرین والمحدئین وغیرهم الى يوم الدین. 

باب ند كواستا زک م جتيدف ات رل نظررت لام مولا رورا را رنه 
کے افادات تل سورۂ نای تقر 0 کون یا ہے كيان یس او دا رت 
سا اوران کے علوم و وفش؟ :رجا ل تیک وگول کے سا تشم ولی تکی سعادت عاص كرحن كيلك 
الف لور ول - 

:شا وک شري فک میت وکت ت کے نظ راس با تک ضرور تی یل ا کال 
اردوشرح مرج بك جاۓ ۔ عزي كرام صاتزادوخرت مولانا مرا صاحب امتاذ ار یش 
بيترت قل دى امول نے اپنے والمكرم قر مرت کر کے شا کر نے کا 
ار .ارتا لی ا نكواورحطريت الاستازکوا نی يا شا بر 0 “ھ0 

يشر نکیا سے !لاکد کات يخقيقات ول قیقا سی »سای شارده وواردم» اشارات» 
روز سار طو پار »عونت وففیاستکا ین مرسع تور رسد اور موتو ں کی بلدار 
توافت شیب - 

دن بش شان جف ازجا کا بق حص مھ یش کر ےکی فو شی عطا فرب اورا كوتطررت 
تا ترس واورمولا :ران ا اج کی وو ی ےرتا ت جا نے 

ویر حم الله عبد! قال آمينا 
ارس داحم عدر 
ادم دار الوم وال 


5 اش 8 3 8 6 اتانس 3 8 8 8 8 8 شر 


ظا ل وي کلف الرضاوري 


حا وک ی ینوی بج رشان توف ۱ و ٠‏ 
متا العام وام الصرف وتو جرت مولن بان جا ىصاحب زیم 
الہ مث جا مع جیما ن ونم ام جنرت جنگ موق رگ ہے 
بسم الله الرحمن الرحيم 
نحمده و نصلی على رسوله الكريم 

اما بسعد!وفاق رای ارب تن کے فز یس بر چو فيسل رمس 
ایو اتب وکرم مولا ناس را اف ز یرید ہ سلا قات »ول 

رت نے تور سنال خضرت وال رگرای »چا امعتول وامنقو ليد نی 
ا رلیس مرلو رو اتب بیماو ىك للم( سورت فاخ )كيوزيف موکر 
طباع تكيلة يرل يل چاری ےک کر دل بار بارع موكيا ورب لزت ہہت مت جذاس 
جرا خر حافس على ان صا تيز اده صاحب ز با مج وأو تهون نے حضرت رم 
ا علیہ کے رارف تروص شود لاکراساتزواوراءپراحسا نيم ف رمیا سج ۔نقرت الاستاذ 
تام امه اور خقیررت مترو لك تنا اوردعات كالم تیال صا جز اوہ صاح بکومز پر ہمت عطا 
رمک هرت انس ےکی ابر ياد سے وشم پا س منظرعام ب لا ست رہیں اک علاء وظلياء 
ا ٹین زار ےبجھر ورا ستتفار یرل 

دعا ہے خداونرقر ول صا تز او مشت كاوشو لوقبو ل فر 55 یرعاش 

تال کل صرت جار یہ بناۓ ٠آ‏ ن مآ بین۔ 
۱ 0 
عبد الت جائی 
درس وار العلوم رنیم مان 
 - 7‏ رر[ 


:© 8 8 0 2 0 کے 2-8 5 3 و 3 


اغ لا وی دشرا ضار 


پب رپ ور D.0‏ 
دانسا ايام الصرف وأ ححفرت ولا وین صا حلب یم 
امح رتلا ود 
بسم الله الرحمن الرحيم نحمده و نصلی على رسوله الكريم 

اما بعد! رتخا نے اس دی نمی نکی طاق تکاز موی تب ارشا سال ے 
إنا نخن ترا ال کر واه َحَافِظُوْنَ 
21 ول انا ۳ر ررض وشن انا رام لسلام 
کی ایک بايركت جماع تاجن تن کے ہرشع کی خد كاف ريضسرانجا مد يق ےگی۔ 
انب مارک ہستوں میں ساب یمس امحتو ل وتو ل خضرت العلا مولا 
- رمتو رق رجات یکی جن #اللدتعال نے مر لس سكميران ف وعدن فك از 
مكل ےمشکل اما نکوانچاک یکل انراز یل مھا زا پکا خا ص ط٤‏ اقا تم رت 
ارس رم اش تقال کے علق“ درل میں اوا یاب وه وال روا شا اکر دو لك ایک 
بت بذك تخداداطراف عا م مس انان سول اش للا کے نورا تلو باورا بلررنی ین 
دل ل ايك ہڑاار ما ن تما اک و تراث جوخر تکی خدمت میس برا راس في ا بال ہو کے 
وو ترت کے فيل وبركات ہے کے تفر بول؟ 
لقال نے بای مب یا نی فسا کہ وہ اد بان اور رت کے غاف الرشید یرف رز 
امد سل زر لیم پورگ فر بای رت کیا درک تاركو ب كنت سے مب فرمار سے میں اھر 
دا نکی تی فکاوشوں ے تحر هبلک تھا ہیروا تک شكل میس طا کی نکی خدمت می سک 
بك ہیں۔ اب ایک تا قیقر بنا ىك شل بیس یل غدمت ےہ اتال 
حرست ےمم ہے مول :ا سر ان دام یڈ مکی تیف ماکان بقل 


فرماوےاوردار نک سرو ں ےداز ےآ لان ۔ ای دعا 
۱ مس نی جن 


:8 جج 0ق 90 9 6 0 3 31 3 2 و 3 


اظ وي فرفر ایغ اري 
© © رز رز ری تر لے 

استااحاسا حر مولا :اراس اتل صاحب زیچ رکم 

اسشاذ الجر پٹ دارال٭عو مبیروالا 
بسم الله الرحمن الرحيم نحمده و نصلی على رسوله الكريم 
اما بعدارأيت جزء واجدا من الشرح الذى الفه الشیخ ابن الشيخ علامه سراج 
الحق المسمی ب”النظر الحاوى فی حل تفسير البیضاوی“ فوجدته لکشف 
کنوزاته کاملاو بجمیع مخزوناته حافلا. فلله دره بذل فيه وسعى سعیه. وجعله ' 
الله تعالى نافعا للمعلمين والمتعلمین بجاه سید المرسلين 28 . 
والسلام 


محمد اسماعیل عفی عنه 
٣ ۱‏ /ذى الحجة ۵۱۳۳۰ 
۱ ہے 585 555 215115 818 29 
و کا لحرت مولا تی السيدمظه رشا صا حب اس دی دامت برا م العالیہ _ 
لباز رت مولا یراس ری وراش مقر ودر جامد سی تا سعد زرارہبہاوپُور ۱ 
بسم الله الرحمن الرحيم© نحمده و نصلى على رسوله الكريم 
اما بعد! فاعوذ بالله من الشيطن الرجيم 0 بسم الله الر حمن الر حيم 0 ٠‏ 
وانزلنا الیک البذكر لتبين للناس (باره 14سوره نحل ركوع 6)تم نے نازلکیا 
آ طرف :ر( رآ ن )كنا لآ اكول سكسا ۓےکھو لكو لك یا نکر يل - 
کت کاب اه سک بیائن‌او فی کا اما مالاگمیا و نتم ا کل حر کر رسول ار توكو 
ہے “تاب الد سیر نانک تكيك ات لی نے روود ل ا ہےر جوامانت ‏ 
وديا کی صفات میل فيال تھے پیدافر ا »تبقل اا ب رسول لپ یک دعا سے 
آ بدا تک دجن عباس ری نع دول رای - 


8 8 55 2 555 5 5 55 © © 5 8 


لاو نت فیط او 


اشتعال ۱ ایےی 0 ذر ‏ ا oL tsy‏ ا 
تیم بالراۓ سكف ونافرراا یر ييضاوق کے ناف ایر بارآ ن دبا دیش سح تیار 
ہو فل و علومقیرلوبیا نکیا اورا ی ططر باه کے ھی ہو نز ان ےو ظا ہرذ ر اس 
كناب ےاستفاد کیلع بیز با نکی موی استدا از جرضرور یت یکزوراستدادوا نے ال نہیں 
اھا کے ے۔ اشرب العزرت نے نیج لكاب ایی ری فد ما كيك اردوزبان بس 
سب سے یواست دوکر ویب شاوول الد کے ابر ۱ 
القادربھرث دیلو روتکو فر اا سس سے اي كول عل ردان 
واو يلق رآ کا مت ان م وکیا تق ہا کےایک ص دک بت کرت اہندمولا ون ولویند 
کول فرص کیل قول ٹر ایا اکے دارهم ون نتاس ظلوطي رکے اہ ریا ٢و‏ ے۔ ۔ 

نان بحر والال ل سب ے يم بیضاوی کم ریس میس نمایاں شهرت اور 
و یت ما لكت وا بإلى دارالعلو مکی والا صر وار العلو م ححضرت مولا نا عبر الق ے جو 
وا رالعلوم و لو بن مقر يها جوسال ناش دار الاقا كي ر ے ا کےعلوم کےا ولا سے 
یس مو انہر وب اس تاذ سا تا لی ی دورو بت مور نا نظو رن 
` صاحب( جک صدردارالعلوم سے شی كنت اورت ریش عب نيم کے بادشادوامام وقت تے )او 
آقیربیضاری اک ریس میس الثم سل وت متها معطا خر مایا جوصيرروارالعلومكو عاص ل تھا ۱ 

شتا فا لت پٹ دیص د کیک ركز رنے کے بح رای کے بے 
اسناذ الجر یٹ مولا ناس راج ان صاحب سے اپے وال مگیم بيضاوق کے بات نه رد لک وخ 
ری وی موق توا ی بساط کے مطا فی سالہاسالی گنت کے بعد لور ادانت ود یات کے * 
ساٹ ری كل کنو كرا کے وان كل نوف دی ے ۔ اش تیال لے ہرطر ح كل تلبت 
شیب ر ا ے ادرائ جن تام ین ہا کیل کش بے( مین ) 
سير رمظمراسعرى پا ددس رجامعمسيرنا ا سح ربن زرا روو تور روڈبہاو پور 


لس ها ذا ۵ 3 5 6 نر 8 88 5 


7 © © © © 6 097:27 © 84180 (ها ها 9(0 18 © 5 © 18 © © © © (2ا ت22 ۵ (ها قا © 0 220 ۵ 243 8 2 68 1۵ 

۱ رت موا نا رصاح باقن دک زیرپ رم 

استاذ الجر یش معهرالفقير الاسلاى جن کصدر 
ضایف یازیو ب الههرا ول رص رر مولا پچ والفتقارصا ح بلقن ری دامت )آم 

اید رب الح زت ک اکر وڑ بطر سيك يوسب استاذ كم سرا اسان تروچ اتی 
مج فى اتد رلیس, امع اعقو ل وأمثقو ل حر مول :رورا تور ال مرقر کی شاوی 
مرکا وا رت کے یز اروك فت ور ےو تد ۳ ان 

عرص سے ينذا در رتست تم بم نار بیدافادا تج پک رتا م1 فا و < 
با ورس توا یکی پیا كو بچھا بل امد خضرت کے صا ت زاوم مولا نا مراک صاحبد 
مل سار بي وارالتلو مکی روالا نے ا يمنال راف ماد یا ے۔ 

رای ا نکی عم رہل ملم ار يسبل نال فرماۓ ارات مکی 
تیا مت جارئی وسارق د ٢آ‏ ین ث مآ ان - 

جرع ےر 
2529722288889088 
۱ تالا یرت دنولا اطا ری اک تمر صا حب دا مت بكم الحالیہ 
م جا مد سے طابر او ہش رو ےر دالا( وال ) 
ومولاغ تار افق ران صاحب شار 
تب م جار یشمسے طابر و بش رو ڈکیروالا(مائوال ) 

بسم الله الرحمن الرحیم0 نحمده و نصلی على رسوله الكريم 

خضرت وال هذ روا رع مق وامتقول سال مم و استاق ار یٹ وارالعلو عي ركام 
رالا وان رورا او اللہ مقر ا کے دور میں نر رس کے باه تھے :ینس موضور کوک 
ابول نے پڑھا یا كاحت اداکرد یا لی ول بو ۳ اکرد ہاش موضورع کے امام ہیں عرف ٢کو‏ 
منطن بی کن فون او رکب عر یرت تصوصا سم شیف خرضییکہ جوا یکناب بذ اف اس مس 


BOREHOLE 


انار دتفا اوق ۱ مہا 
55 ۵ 5 5355 55 55 555 5555 635 133351213255 3555553 5 53 35 5 5 
مز تشر وتو جع مکل ی اس ے ا نکواینۓ دور میں ناتم ایدرک ن کہا ہا نے لگا۔ ب ےڈ ے 
ا ول ےاستقاد وکر ے تھے_ 
: رركم مولا نا سرارج ان کے جورت وال صا حب رت ال علیہ کے ی وارث ہیں اور . 
دارامعلو يبروالا یش عرص٭۳ سال سے راد ے ہیں او نے فرش كفاي ادا کے موس كم 
سب ”ھا تیو ںکی طرف ےرت الد صاحب رم2 الیک یتر مرو لكوي ع كرا کا قص رک 
ہے ا تھی ا اوک میا بفرماست - 
رو ور ا "رای لیذ م2 یبس رارج لمنطق ( شر اردو ایا 
م( اور که امتظور' 2 اروومرقات )غا ہوک ا كلم رات کے بای بہت زیاده 
ال عا لك بی ےا ملق کی تو رتا يم یاو شري فک شرع لایس 
نام سے شاع مورى سے -الن شاء الث ال کے بج رر پر رت والا ی در پارو ریب 
ضر وا کےا کا ما ا گار ۱ 
دل دعا کاش تفای ان شروحا کی ین اورا مکل نافع با اورمقرت 
والدصاحب رھ اذ علي اور رادرم سالک صاح ب كيك ایل ذ خر آ غر ت بنا 2 _آ شن ! 
بوالطا برس اك قر 
“نتم اضرا 
اف را شیر 
2222228222٤9‏ 


© 5 و 5 5 © 9 85 18 5 5 5 15 2 © 5 9 ا 


غ ري نک تن انتضاري 


ولع لو ای ی ا 29700090/9 © 


حفر مولن مین ما حب 
استا الم یٹ جلدحة تشن وخطیب حا مر الق لش شيشا روف )ان 
الحمد لاهله و الصلوة على اهلها ............ امابعد! 
ساوک ءفضيلة وخ ہی رما وو کلم 


م پل ریں 7 سل RET‏ 
وله ج 7 ار یت 


7 کا ھتاس ےکہ اک مکی زک ورد .پل بندہ تچ اود 
کہا تکس یکی ...کدنا ریش کے اقادات ياي را ...ره ماگمه 
اسب اق يذ ل ہیں ادن فی ار ریس ونا وض مکی و صرف يرحت وشهرت ی نی ےا نکی رفت شان اور 
علو ما مکاانداز امل جات سے ایا جاج! سي اتا كترم ریت مت یبد القادرصاحب واستا کر م صرت 
ار رارسا بکترم ضرت اق ر ولا ارشادا تر صا حب وات یام سگم حر 
اما :میرن جا صاحب داصت پم لام نگ ان که جس راء ہیں۔ 
ماه نات لام شش تی 
اور ازرم الولد سرلابیه کے مصدا کال اولى پان ول _استازكتزم فد الدظر الحاوی 
فى حل تفسير الییعضاوی ٣ر‏ بک ساملا حا م راا چ اتان اتاک مات شاک 
قولیت تار ماوت ردو لپ ےیل کک بنج .2 _آعين بجاہ بنى المرصلين. 
ڈھاگو 
محمد مرسلين 
استاذجامعل الهستین وتان 


وه هو وو وووو و هو و و وه 19 15 19 15 


اقفر رن نشار ا 
28 2 


25 جا جا 28692 12 5 10 22 45 120 :1 89ل 69886-686 88-8-6 584-8 
رر 
و کچرق اتر ريل خط ررح مولا نا عم غو راک نو راش مرق م 
سا استاذ الد یٹ وم دار اللو مکی روالا 

نام ومسب :نتقو راان بن راک بن اد رن بن اشن را ملام جن موم جن ال سا 
ہن درگا ی رای کے چت ما ہرادا سپ ا نے ونت کے باعلا ء میس سے کے ۔ 

1 وم ”وا تونق ےا مطلب انفلك بز رك ,کول انان سك اكثر 
افراو ول راو رک تر ین یا یں ر 


چ :اترا ی لم اس والدصا حب ریت مولا تا ورای ٹور اٹہ رہ م سے عاص لك ء بعد 
ازال اسب ضرت مولانا عبد الاق نور لڈم فدہ ےگ اکتب ہیں )موقو علي اور دورة 
عد مث دارالعلوم دیو بد س ےکیا۔آ پ اسان كرام یل رت مولا نا من ات مد لی ظررت 
مولا ناعلا مھ ورين رت ولا تج مایم بل :حطر ون ینیع ,ریت 
مولا ناسیداصٹ جن رم اتی ی تم سماو كرا شا ہیں ۔ 
رال :-دارالعلوم دي بند ےفراغت سک وحرصہ بد رہد اش لاسام دم رجف 
او دمرس عر يبيج ين عال شل نل رٹ كا ءال کے بح را کے پا مولا نا كبر الخال ق نوراش رند ہ کے 
دراو يبروالا بنياو رسكت کے بحر یہاں ندل ہو سے اورتا رگ دلوم سے واہست ر ہے۔ 
آ پ بل ات ریس هجو شس بات ها سا وال ہا تک ےکی عادت 
»الب ون سوالات پرا چا خیش ہو کے اور وا تم قیفر ہے بمشكل ےتک 
يا ت وړک هه بات نر لك کل ساك بناد ہے برع عبارت اور اغ رات بصن و بیان 
كرا پا نی شعارقها- ادب لیا نکی يبل بذ ہوا تھا رف وکوا نکی افیا اورمنطن 


و ههد و دود و دود 45 915 ا 15 فوع 


اون برش زارت ا 
سیر رز ری رب جل 53232 1 1 2186 :3 12 15 :189 92 :1 1 :19 :0:9 9/1500 5 
SS‏ اور 


دل ها کر یگی۔ ۱ 


كيرت تم وارالعلو مکی روالا رم 07 ب کے با خضرت مولا نا كيد 

اقا رتم ایشرعلیہ مدر دارالعلوم دیو بند نے 19۵ یں رن ایی کی وا نیا ھی مل بتو كو 

مرکا لا سے ہو سے ادا ہکوایک متنا م طا کیا عضرت مرحو مك شاد نگ »لسن سیخ 

۱ وگن مولا رو رن او رترت مولا شرا کہا اتا وا اور ۱ 
اداه روا دی سیسات راما - 

حر ت مولا :عبر الق رھ ارہ تیال ان اما وق 9 

تا یکواپنا نشین بنا دیا وہ نام م او نام کےطوز يالك ترك ملكا کے دس اورتادم 

وفات :ا تپ »رانک وفات کے اعد اقا مان کے سپردہوا۔اپے آ سا وو را تام یں 

دارگ دو شدمات رانا مد میں اور یھی میرن میس ود تی د یکاش کے اث امتح تك اللہ 

موجود ہیں » ادا مکو با م گرد کک یاپ پیش وارانہصلاعتو ںکی بنا بر دارلعلوم می وو نہ ریک 


ام جارك فر مایا شس سے بڑے بڑے درل ومحرث پیداہو - دارالخلو مك مب وہ سای دورتھا 
2 رتك ونیا ل داراعلو مکا نام رون وت 

مرت ال دنورا او مکی سب يقبا نکر نے کے ٠‏ 
مذ ےک شال بی ےک جب وا رالعلو مکیروالا میس قا کو لكو رضن نے اتو بل میس لئ جس 
سے دار اللو مک ایک وج رق لومت ىو يلل میں پل نکیا نو حشرت وال کو واراللوم کے منیا رکا 
جنون تھا اننہوں نے رال رات سر کے پال وا لی لاود درسة البنا تك د كنال جگ بر ت کیاء 
گیگ وہ کت ت ےک ہے دوول جزل دارالعلو مکی شر برضرورت ہیں۔ بعد عل جب جندش نہ 
حناصرتے اس وتنم رانا چ اتو خضرت ول نے ایارک ینیم قال تبك دا الوم اط راس 
قاو ريا را کی اما رت لت صا حب رم الله کال وقت برل ال 


2 5 5 سم ىا 39 02 88 ات 


الاو يكرك ,لبط اوي 


تسم 3 ۵ 2 3 5 سس یہ سس سس 92 5لا جنا ذا 353355 9 یت 9 


ےپ روکد یا کشا ينعن صر اج بال جا کےاوردارالعلو مکی جا راد يرا 2 5 


پور لاه :_ حضرت مولا مفتی عبر القادر صاحب نوراہ مرت و سالق غ اليربيث ومفتی ' 
دا الو مكيروا تارادا ز ید چنال یت وتنم دار اللو مكيروا :حطر موان 
رانو را وکاڑ وک صاحب ز پر« رل شع الركوة وال رشاد ام ترالممدارس متا ,نط ررت ولا نا 
تطغ رات رتام دمم جامعہ الد بن ولید و پاڑکی ,خضرت موم نا جج ارف شات ی سروس الق 
“نم جا دراش فی ما نکوٹ ,”ضرت مولا نا سد )منرت مولا نان نو ازم وی 
هي فو رارم تہ نط رت مولا روا یرید م جامع رف قادر صا دآ باد مان »حط رت 
مولا نا چاو شاه ز ره ویر حطر ت مولا نا جر اکن صاحب استاز الہ یٹ جامعرخالر بن ولیر 
وپا ڈ ی وظیبرہ۔ نیز ان کے علاوه انرون ملک اود بیروك ملک تام بڑے اور يمول برارل مل 
رت والا کے بالواسطه یابلاداسطشاگردا يق خد مات سانجا دےر ہے یں - 

قرا حطرت وال خوپ صورت انان »ير ين وتتش رع یت ءنا مور عالم د يين» پک | 

سیرتہ پا مت »رومن وج انظ جلي اطع رک اننس ا عت ليش تكس رز ار»بردياربطضسارءعالى 
رف استا وال منوا ریما تون ےم لے ابی رکا ے تے۔ 

وقا مت :-۱۱/ رمضمان ا مہا دک بعد ازمازحصر بہار یکا شر پر ہوا خر بک نما ز پا قاعره ارا 
کی نماز کے بعد ابوس پات پھر سے کے أب ل ت چات کے دو ران کا مل موااور 

وی چان لیوا ا ہت ہوا۔ برو ز مکل ۱۳۴| رمضان المبارك ۳۰اه مطال ق۲ اجون ۶۱۹۸۴ 
هرا دنيا فا یک وچو كر اين خالق شق جا لے ۔آ پ احاطۂ دا الوم میں اس بی 
جو نو فا وھ ار ی الا کی قرو برد 
رن با تن 


35 3 5 2 5 3 ۵3 5 35 5 5 9 


53535555 555 ہا سی 


ام وي كركف التضاري 22 


15ج هو و و و و و هو 15 19 9و 18 99 :8 5 12 :8 223 3 5 532 635 5 بت 
عرش رب 
المد لاهله وَالصَّلوَةٌ اهلها» أمّا بَعْدُ ! 

عق کی لت شان رفت وکت ايك بد بی جز ہے _صد ہیں سے يتقف 
صضورؤوں ل عا کا خروم باب اوران شا اتتا قا مت ر ےگا- 

وی شری ایر ناب a EG‏ 
صاب اود زيط ر سح رت وال گر م لام رو را نوراش مق« جنگ را کا 
مشاه اتند ریس اور مخ امحقول وامنقوال جيب و تيع القاب سے یکی جا تا ہے۔و ےل 
شرف نکی ج وکا ب بھی بحا كوي طالب بمو لول يديت ین چن کب جنك ند لس 
ل دہ بہت زیادہش پور ے ان میس ضا دک شري اوضا ی متا م اکل ۔حضرت والدکرم نے 
سالجا سال اہ یکت تک تر ری فر ما ورک رات طلا فدہ نے در تق رک ول يرس اور مسا 
بل ا کا یکی سیوں مرت ٹوب کرو تلف رات اس سے اتتا دہ E‏ 

ودی ر۶ 01 E‏ اس ارت ءاف رض مص فل لور یوضا مت ء اور تل 
#بدكسة ليزن نداش لي كنآ سب كاطرةاقيازق ال بات اول نس ہوجانی بج 

ان رسيا وز زاو خا ںی نی دفو دل می داعيم یاک ام دار 
وگ کے درعياك یات اهادي جا س »تا سے استتفاد ھکر کے قوب ورقو می 
را الک یا راده تکام 7 تا کی اوراشتها رصق وي يل نض ناک زو جوا تک بتار 
جا دوع رت سكت نر و تی کا ار كر بور ندال تیا سب 
مالایدرک کله لا یت رک کله "رکفت ہو ۓ بن وسورة الفا رل ر ہم کر کے 
کی جلت کر ان ےکی سعادت عاص کرد سے 

ال ست ييل بنده شرع تب یب »ایوگ اورقا تك حطرت والا کی درک تار 


>-ووھ ٠‏ قا جاه جد جه 39 1 2 جنا HORE‏ 


070 2 
© © 66 5 ها 53556535955 3531255555555 :9 2-26 3 ۵ 3 6 ۵ ٭ ‏ 80189 و 8 وی 


"مار تز رن مس مس امنطور کے نام سے شالع کر چا سے اوراس شیو 
بضاد یک دقرم الحاو" ۲سا سي كر ےکی سعادت حاص کر اے۔ 

شر کوکا ی فی اورا مند بیانے کے لے يا رتم اراب اورت ج کا ی ٠‏ 
اضا فكي اكيا ےکا ی شر کا مطالعدکر نے وا اکنا بکاجتا جع تمو ۔ 

اظہارنشکر !بن رہ ان تا محرا تک نچا نون ہے جنہوں نے ال شر کی تیاری س 
کک کی درجر جل ہنرو کے سساتيد تیاو نکیا خصوصا خضرت مولا نا مجر اکن صاحب استاذ الح بیش 
جام الد جن ول وڈ کی مولا تا رین ایا وی رر وارالعلو مکی وا ار وا رازن طار کا 
ها منوان ےج ھوں نے ال شر ا ٹیس هک رات دیا 

اور ہکات ناسل ريل کے گر بنده حر ت ولا فرصا< بقن ری درز 
اریت ہر الفقير الاسلابھی جحي ل ص رر خی مياز حرس مولا زا پیر ذدالفتقار صا حب لقن ری دامت 
کم اوران کے وس سكم رارج غلى صاح بآ کین اء اور ۶ز :کی ححقرت مولن مھ رین 
صاحب ابیت رت سنا نک زر دک اد ا ان کی ترا نتراک . 
ره مارتحاو ن شال عا ل نوت تو ایا ی شرح كم ريرق سالو لكك کی أدبت دا کق۔ 

7 لا سکاب سے استتفاد کر نے والوں سے اسدعاء ےک گر وو اك كول خولي 
راز خضرت وال کرای اورا کی مايره بے اعت یناوت صا عل ی درل - 

آ خ میس ال شر کا مطال ھکر نے و٣‏ و کرای ں 
بثره منت 599 "مم رمع ہونے کے بعد بند هلو کاو فر اکر 
ضرورمنوزن فر ا یں تاک تند وا ینیشن تلا نک بدا شرب العزت سے دما كران 
کا بکوقولیت عام عفر ماس اورتخرت وال ماجدہ بده ادرو يكرمعاوي كيك زره رت اور 
خجا تکام بر بناۓ ءآ مین۔ وال شا مس اج اعد 

استاز ایر یت دارا و میردال (خاغوال ) گرم رام ۱۳ج 


وق 5 2 32 2 جھ 62ے :3 (ها 25ےہ ضغفجھ 


النظرالىاوي ركفي التضاري اس 
BPH! 5 55 9555553555555555 55 555555‏ 


بشم الله برض لرمیم 


شرو عکرنے سے يحل عندالصتقد ن1 کے زم اور رام غ ن جز يل 
جا ناضروریؤں- 
(۱) ترفن ی ره یل وم و( مرو :جک انز الوم 
لبا قير سل ہو( ۳)غرش ونا تاكن :حا اک یلب میٹلازم نآ ے۔ 
۱ نی ہے يها ںی رشن کے دعب ما 00 
کیا جات ے۔ 
( تی فی (۲) مضو عفن (۳) وش يفن )مقر( )ضر ور انی 
(۹)ش رات وم یر( )ما رالاستمد از ایر )(۸) مالا ت صف _ 
)١(‏ لت رليف: خی کے متا بے مل دولفظ بو لے جات میں تاديل اورتریف ۔ ان تو لكل 
تق روضاح تک مال ے۔ 
(ا )ای :لوک ی تق :لفت کے لاط ےا کے اد ةلتاق میس اختلاف ےت حطرات 
کے ہاں اس موجودواور اص٥‏ ی ماده تی ےت نک ام ہا ابائ او ريت 
رات کے بال ال کاس مادہ صفر سے اس می سقلب مک سےا کاس بھی انا روپ ی 
سججييها رمث شرف اس را بالفجرفانه اعظم للاجر یش اسفارابلة سك ثيل 
سل رپ ۱ 
كلع:_سَفْر (سكون الفاء )مسافر ۱ 1 مه کما فی الحدیث اتمواصلوتکم فانا 
۱ قوم سفر . ماف ری ماف رای كباجاحا سف میس اظهاراظلا »وتا اور ضفر 
بلع )معن اظہارواباے کت 


8ه هات اه ها ه 8ه ی(ھ اج 8 8ه 2 ها 


۱ لاف وي فا قاس ˆ : ظا 


82664 08 44 88 29:22:2202 228:0 33.44 86 3 88 29 36 4 646 6 .80:55 
کرو :اس ل شاف ےکی لغوى واصطلاتق بی ما الاش راک ضرورئ سے بال د 
امام راغب اصفهالى کے نز ديك کین | ب الاست راك واجب ايان دور ےرات 
دبا ہراشا کو شرو رک تريش ے۔ ۱ 

ود ان :)اسف رال لب رایع ینب 
کیو قلب کال تار ترتع کے تت بول ہے اور اس متام ول 
ضرور ت شر یتلوم یل موق نان صاح م لصیف کہا ےک تلب مکی اویش کک 
تاو ےاوروال قل SE‏ لمصوافتقة بالق رآ ن مو 
جا یوک رآ ن جيد مل ا الفا جود میں جن می لقلب ما ے كما فى قو لہ تعالى 
على شفاجرف هارفانهار ا لآ بیہاں ہا رکا ال نادهاشتنال روه اسان 
ا ر کے جواردالا او ن گیاے۔ 

اصطلای "ق): اک سار رل پھر 
طور رفظ را ا لوقي لا جات س>- 

ول (۱):_ السفسیر هموعلم باحث عن معنی نظم القران بقدر الطاقة البشرية 
۵0ہ" ۱ 

تول (۴):۔ ول علا مود اد ی6 ےالتفسیر هوعلم یبحث فيه عن نطق الفاظ 
القرآن واحکامھا الافرادیة والتركيبية التی تحمل علیھاالتر کیب الآ رف 
NE‏ ۱ 

وی( ۳۳ ):۔ ول علا تازا کا ےھو علم باحث عن اصول کلام الله من حيث 
الدلالة على مرادالله تعالی ۱ ۱ 


8 © 4 © و 6 ف ها رق 9.9 5 6 6 ۵1۵ 8 33 


انبم اف ری 7 ہے 


8 ۵5 55 5 6 © ها 6 55 5 1 15 53 2 ذا 35 5 © ۵ © © 5 ھ88-8888 5 35 8 8 130 9 کت 

ول(م):۔ ول سلمان ل قول اور ىما رع رانف هو علم 
۱ مخ عجرن ل ی سد لاش اد 
و د مس ياتقضيه الفراعد لمرییة؟ 
(۴) ناو يل :وی :ال يسول رک ےر جو غکر نا اورنساویسل با تلا 
مصدر ےکی ارجا ع» رجور لروانااورلوثانا - 
اصطلا ی في :ال می چھ کی اتال ہیں۔ 
تول(۱): - امام الوعبيد وك بال التسفسير ساس اذفان .708 
ربعي دروا لآ یات ار بدكاانطباق ہو جا ۓگا۔ 
قول( ۳):- يامام راغب اص با کات العفسير یستعمل فی الالفاظ و التاویل 
یستعمل فى المعانی نون م العفسير یستعمل فی المفردات والتاویل 
یستعمل فی المرکبات ال وقت تا ول وی ری این وگ ۱ ۹ 
ول (۳):. بي امام الو مور بات بھی ہے قول هافر وت بھی سے 
التفسير القطع بان مراد الله تعالى هلكذا و التاویل لیس فيه القعلع لعنواان در 
التفسير يستعمل فى الرواية والتاویل يستعمل فی الدراية 

اس سس معلوم جوا تفر لتب يبل سے ماو دصلا ان دیرو بلغي ركااطلاق 

ما زی ہوتا ادراب ترا وير نی رکا ا طلا نشی »الى لے تاق یاو رج 
اشتعال نے انی مصت فک نا متیر رک ےکی میا ے انو ار السزیل واسرار التاویل رھاے۔ 
ٛ قول( 0):-التفسیر يستعمل فی الكتب الالهية وغيرها والتاویل يستعمل فی 
الکتب الالهية خاصة التق كا تيار سے دونوں ملس تکوم «تصوص کی پان 


موق © جع © 8 5 5 85 15 :88 5 ا 3 8۵ 8 ا 3 6 8 


لفاغ وي يحرتفيرالتضاري 


77 ا 00ص 
( )خر یف :لوک ن :_تحريف الكلام عن موضعہ ای تغييرة (کمافی 
مختار الصحاح )کلام لوپرلدینا- 5 ۱ 
اصطلاى :بيان مراد الله تعالی بحسب خلاف ما تقتضیه القو اعد العربية 
رع ہے کےخلاف اتی وراه یا نکر کے ا کو پاری تیال کی طرف موب 
کر یف كت ہیں - عنوان یراع ی كت ہیں رپا سل 
قير پالراۓ ال فواعزم بپ موو ہر ے۔ 

)٢(‏ وضو مقر دمک وضو وو ہوتا سل سل وارش ذ ای سے الم نت 
0 بك وار ذاحم رادات ال ی بل اموضو اخ ناخ کلمت 
(r)‏ رس ونا افير :-تحصيل سعادة الدار وو رات چتروسا 7 
سے کول سعادت دار بن عاصل مول ے الاعتصام بالعرو قالوٹقی ےاورالاعتصام 
بالعروة الوثقى حا کل :و سم م الشرعی سح اوم بالا کا مالع وف ےم 
ترآ چاو م رآ ن موقو ف ان نیم اچندوسا ئا ےناخ کی خرن سعادت دار بین 
ہی دادن ےد میا وآ خرت دول مرا ہیں او رتقیق تک بجی ےک رسعادت ارو 
تی سے یوم دنم سے سعادتد نوی کی ما »ول جنا غرارشاد ہار ی تقال ے من 
عمل صلحا من ذکر او انثى وهو مؤمن فانحیینه حياة طيبة (الأية ) اورمشابرات 
سح ثامت سک تنا میرن ی علاء يفقباءاورصوضي كرا مکی جما ع تکوحاصل اتنا نیاوی 
دشا ہو ںوی ها لنش قول با ری تعا الا بذ کر الله تطمئن القلوب نس - 
(r)‏ 7 یر دس رآ اك ميد اودترا م کتک سما ہے يرا تمالا امن لا نا فرش كدان ے او رتحوصا 
1 نك كم براںحشثیت کر 7 ن می ہل کر نے کے كلف میں نمی مان لانا فرش 


نت © 8 ۵ مرف ۰ 6 598 85 888 


این ا ار وج دوجو 9٭ 6‏ ل2 


ان ني ا نر ران نا ا رمرم قرط 
ال کرک فر ض عدن مو جا ۓگ الا طرورت کے مطا للم رين ماص کف كدان 
تی دی نكا اص لکرنا ا 
(۵)ضرورت ير ف فی کی ضرروت انم شس كيوك لصوا كرام رضوان اله 
مہم وکر کو ووس ے بلاوا طا پا ےا نل بس اوقا تآ پا ف کے تعلق ي 
کر سالا کے پڑت جيب اک آ بت ختی یبن ےک الْخَیْط ایض 
الخ. رت ع دک بن حا مهو ہیں بط ربق او یق رآ ن بجي اوبحت كيلعا نير 
کی رورت ے۔ 

. خضرت ع رک اہن ما ے روات ےک ج بآ متختصی ین لَكُمُ الخَيْط 
لب من الْحَيْ ال سو تاذل ولتو نے ایک سا ددہاگہاورایک سفیردها گریااود 
دوف لکد چگ کے بنك کول دوفو كو وتا بادا کی تار بی می ووفول میس ببوفرق 
معلوم ت ہوا اتور فاك رمت ل مارا اروت لکیا۔آ ب 1 ات نکر 
أل يده ادر یر مانت لعریض للقفا( مطلب یہ ہ کل چ )يها ل دن 
سفيرى اوررا کی سيان هراد (معارفالقرة نكاننعوق) 
(٦)شرات‏ مج 7 یر يراي رل اورا ف العلوم جا 0 
ی شرافت ا سک معلوبات سے مولى جاور في کی علو بات مرادخداوتدى) ہے جوسب 
9 وغل ہے ج بی کی معلو مات سب حال أل موی ]ری سب 
سرا براك 

ب زکسی ف نکی شرافت 00" وچ سے ہوئی. سے ۔(ا) شرفي ضوع 


(۴) شرفت عرض وتات (۳) شاف سل وا کام (۳) درت احتيارع _ا وت رای 
و زر مین زرف شا ان سا 


ا ری یک کف رها ۳ 


أن ےجس ل برها دول جز | ۳۳۳ رکش ما 
رعضت الام صفات سے شرف وبرت بز ا موضورع کی ارف امرض و عا ہوا ای ط رح 
نش ونيا مت سعادت دا نگ تام اخ راع با سوا سے شرف ہے۔ اور مال وا کا تھی مراد 
ال ہو ن ےکی وج سے اشرف ہوں کے اورش ر ایا پیل ہیا نکی با کی ے ات تير 
اشرب الفنوان »دیرگ الک چا دول چنب اشرف ہیں- 
دای میں اختلاف سک ری | ض 2ا مهد بیثہ وولو ں ط رح کے اقوال ہیں- 
جن کا خيال کال وهر دمل دی كفن قب رکف کلم اش سے ہے جھ 
صشت اش ہے اور ذ ات بار نا یک طر, منت ار تیا کی ق مر ےاورج رصن م 
ہودہ أل ولج حديي ثكأخلق رسو لكر 89 جوز ات فان سےا امتحلق 
بھی فان رگن ابو 

اورم میت کول تر اردیخ وا ےگروو دل ےد کے ہیں ری کا نحل کم 
۱ ی سے ےج كلوق اون عد کی کے ے جوقلدق بیان اشرف 
لوق بلق بس ب کت اشرف افلوقات ے ہو انل ہوگی۔ 
( )ما الاستتمداد:. ومذ رال جن سے تم رآ نی کر حلت ہیں ا نژ ترا 
ما لیمک لد ۱ ۱ 

2172 آيات دو مکی ہیں ایک دہ جو ات ساف اور وا ہی كر توق على زبان 
ہا ۓ وال انآ کا فو رأ انك مطل ب کے سک ایآ يات فيرظ اختلاف را ےکس 
ایام »یات ذف لضت رورا لبمس وش باب 

دراک دآ یات ہیں جن می كول ايها مي قا آش رک بات باذ جا ءال حکو یکن 
کیل ا نكالور ابل منظرجانناضرورق ہوتا ہے يان سے دقانو مسا یا گر ے اسراروموارف 
مو جو وو٘ ٤جو‏ وت وچ ووڑے جد + :71 ونا 


وم ہس 


اضر قاری فص کار ۳۳9 9 
e‏ یا تک تر که تناس ا 
ضرورت »ولا 11 13 اتل يم اتیب رم عد یلاب ۱ 
()ق رآ نکریم :تن اولاقرآ نکر کیرد رآ نكم ےک جا ےک یس سورج ترش 
جملہ چ عسرَاط الّذِيُنَ نعمت عَلَيْهمْ ۔اب یہاں بیدا نی لک افعام اف نون 
سے ہی ںو دوسرییآ یت مس ا نکود اش طور تخي كرو گیا »شاد بار یتال : 
قازلبک مع این نع الله يهم ین این َالصَديْقْنَ وَالشهدَاءٍ 
َالصَالِحِينَ خسن ایک فا 
(6۳ دی دپ بقع تکاچوگ قد ی ق رآ نكري مك اہین قول و کے سراتھ 
کلت کرت جاحلك دورق رکا خز اماد ےش رسول اشا إں- 
( ۳ )توا ل اہ حا كرام کے رآ نک مک کم برا را ضور بل سے وص کی ال 
لئے اعاد ی بوي کے بح رسب سے زیادہ توق ل نی ریس یا کرام کا سج الہ ت اگ رکآ ت 
کی میں سیا كرا کا اختلاف ہو بر کے * 7 بن دوس الیل رش یش 2 اتی 
92دیع إل- ۱ 
()قرالج مين :ین کے توا ل لی میں بدى امیت رک ہیں اك چ تا اتن سل 
وال یرل مت ہے یائ ہو نے کے باد ملعلا مک اختلاف نا نکی ابیت 
سےا کار ںکیا جاسکتا۔ 
(۵)لشتعرب :ق رآ نکری مکی د ہآ یات جن می تضور یا كرام یا جامد سكول قول 
روک دا نكاآضي عرب ےک ہا ہے۔ ای ط راک سیآ یتک رس اختلاف 
مولو ما اک کیلش تکرب ےکا م لیا جا تا سهد 
)ب واشنپاط :ق رآ نک کم کے کات داس ار ایک اليا ندر ےج سک کول انا بل چنا 


ار زر ڈو 7 
رو دم در یز ادر رل وت 
ات اور برای وقت قاب لقبول ہیں جب وملزشد تہ اما می سے و سس تالم دہوںء 
كران کات یس سكول شرق اصولوں سرا مونو ا ںوی اتپا رت ے۔ 

رہ شش رمالا ر مصنف :نام وسپ :نامع رال یناث راز 
شاوی _کثییت :ابا اوسر - 

پل :-بلا د فار کے شه رشيراذ کے ایکا ول بجضاء عل بيد 41و ء ای لئ شرازی 
بيضاو کہا اتا تار يبد أ عورال ے۔ ۱ 
عالات :علام بضاوی رح اتیل بڑے عابد زاپ ی یی ز گار تھے تفر مد بیش ءفقہ 
*اصمول فلخت او رتلا موم عقل ونقلي. یں وب هارت رک تھے ببہت سار ےو نکی 
شر نکی ہے۔شافتی الک تھے .طول بر ت کک شيراز یس ای تناس هد« ام 
رس تاغل ہتخت اس لئ پر قاس و کرد سے کل شرا تمد عله 
ادرو ں طول کک نه 0 

قات :جارد وفات ل مو ينك اختلاف ہے علا مرا کے البداید والنهلية شس 
5ل سے اورطبقات الثافعير ل ۲رچ وت 691 ثري ےی علا شہاب کے 
بالازياد«داة 691دے۔ 


اصائف:۔علامہ بشادق کل وه صاتف جو پیش کیلع لوأو كل راہندا یکا ہب میں س 


ڈگ ہیں: 
(1)انوارالتقر ل فى اس رارا تال (ز2)افی:لظصرى ن ورای لنزی 
(3) شر مم لوی )شاي ` 


اہ سے چ+ااوااس“ھشسا ھا ت۱ 
(5) وا تام رم (6)للب اغ ۱ 
(7)مسپا‌الا روا بن اسول الد (8)نظامالتوارق ٠‏ 

(9)ث اسول فى اصول اند (10)منها رح الوصول اكلم الوصول 
(11)اینان قاصول لین .۰۰۰ (12)مرصادالافهامالمبادق الا كام 


(13)شر مہات الوصول (14) شر ات ف اف الق 
(15 )نشم ری سید (16 )تابن اطق 


(17 )امز جب والاخلاق فى التصون (18 )شرح اقب فى اصول لود 


۵۲ ۳ وب و نو ویونودونی وب و چا 


سم سے سیب یں برا 


ل2 وی فک لف الف یک 
سک سی مم سس ھت 


0 س 2 


1 ۲ ۱ بشم الو الرخمن لن الرحیم 
لْحَمْۂ بل لیڈ تہ ر الفرقان على عَبْدہ لِيَكُوْنَ للعالمین دیا 
تا میں ا اتا كيل یں جس نےف ر تاوا بن سے زج اکردہ پان دالو ل كيك ؤرا له 
والا ہوچا ۓ 
يفطي سج جس میں قاس بيضاوقا نے تعیب اور پا ری تھا یک زک کیا ہے يبال ہم 
لطبك نض دضاحت اوراس لفات کر میس گے۔ 

وین کی عادت سک بترا كتب نم او تم ےکر نے ہیں ان ملق 
یل و کرات دمرات سے پیز رگ ہیں فلا نعید ها انیا 

کرک نک عادت سكت پاری کے بحدلفظ السذی سے صفا تک گرب 2 
یں اس یں ای با تک طرف اشارہکرنا ہوتا ‏ ےک پا تا طر زان تج ماد سے 
تی یں سطررة مفا کی تم عام کے ن ہیں۔ 

7 مرخ مع بالذات مون صرف با تو یکا خاصہ سے اوقت دک ماه 
وصفاً جاع ل تین کر لھک یتحریف میں رسوله محمد وك كاغاره 
کر تے ہہ ضورك رم یپ می کار صف رسال تك وج سے ہیں کر ؤا _ 
قا وتنام صفات بی سے الذى نزل الفرقان وال ف كوكرك ريسل تین میں بل - 
)يللآ صضعت براعت ا ا لك برے۔ 


زغللا وي لے إلضاري 


505605 5 95ج © هف 08 60 8640 65 4664© 26 8555956 
(۳)پاری تھا مو جو بات ہیں او ركم موجود با جاده ذل اس اظ ت مكبد بو اور بارا 
تتام مول وم و چ ہو ے اورحبد یر يمول کی اطا عت لازم ے او راطا عت ب ہوک ے جب 
کمرضیات واحكام بارى تی ى علوم مول اوران مرضیا تک متب ہوسا ہے ج بک پ را 
تال ا طرف ساي سول تاب از ل فان یں اب الذی نزل الفرقان ئل اشارہ_ 
کرو اک ں ررح بادك تھالی زا ناب ہیں ای ط رع اس وج ےبھی ن عام ہی لك 
مار ے لے اپنے بت کاب ناذ ل رال می ای مرضیا تکاذکرکر سل اطاعت 
کا ر یسلا یار 

۱ ( ۳ )يز ان دوت وال کے علاد م تسافا تد یی سكاس جل سے کیل کنو حي کر دی )کشر 
اش لا ال الا امش س كر جب با رک تیا نی ا شف مایم ںاو وی هن موہ ہو ع اورالذی 
نزل الفر قان لجر رسول اشک طرف اشار :کر لكلل حيدق لت 

نو لک :اد ہیں اخزال زيل ان نامع يك کی ہیں اصطلا نحن بك 
فرت افو ی ن ے تحريك الشی مبتدأ من الاعلی الى الاسفل . 

جن پر قو ڈاافرق سکن مرک ری فق موز رك 

تیگ مول ہے اور یف کی اس نے کہ باب یل کے نوا بل کل اور 
زل رت مق نے 2 ب کیہ رک مر ری مدان باصم 
ریدق موی ۔ 

ده : تی کی اشياء رکب وه رم ب ل (۱) تیر بالذات اور وه دامر موس ہیں 
(۳ ی رش اود ها رش ہو تے بل پچ راع راف کی دوس یل -(۱) قاری الموضوع 
اى” ال ج ابش یڑ ے بسوادويياض- 
(۴) خی رقار فى الموضورع يلل سال اورقر تلا جر مول جيرا 7کت فک e‏ 


3 5 55 15 15 35 5 555 55559 


زغللا ون نکن فیط اوي 7 
کے و رز 
ا تبيرئبات کے هرق بيضاد یک ابارت پرایک اعترائش موتا - 
ا تر ا :ای صاح ب کا تل الفرقا نک ےک رج ب لکوف ما نکی صفت هنانج جکر 
لک ی ری کا ج اورف رقا نکلام اللہ ہے جوصفة ازل قا تل بذات البارى تی سے و 
رقا ن صفت بو ۶ش ل سے سه اورفرقان ع كرك پال الکو بج ہر 
یں اور رک پا کیک کوک رک ہیی کے ےرک ج مركا واسياضرورئ ے اور یبن 
مف تارك مب ماش ہوگاج بک ييل بارق تھا( ج ہر )کو رک اکل جواور پار ی تھا ی 
ترک سے منزہ ہیں بی صف ت فرقان بي ترك کہا ہد از كوفر قا نکی صفمت بنا سی 
دی یج لوانت 
جواب:۔ ج شی طور یہ ہے اورختا ترا خر ین سج سنت لضفت ا کلام با ری کال وک 
دم ےو کی >الذى لافسه صوت ولالفظاورا لب پا فی رال لے 
حول تشک مشش کی ے جوم ول لن الحروف والاصوات سے برا كلا فش پتزی لک 
اطلاقی چا زی سے اس تريب حال ول (حضرت جرا کل ین )کو بو ان کے واسطر سے 
گول وال ( فرقان )لريب عاش ہنی گی _ ۱ 
ا كراش :سق رآ ن یدک فت تہ لی س کا سان دیا سے بکرم مل يريط ري طور 
ببس سال میں تاز ل وااورعضت انز ا کی كلو كفو ےآ سان دنا دقعد نال ہوا 
(اکہ چب راززال زقس اختلااف ےش كنز ديك انال لفق ایک مر ہی او راعش 
کے نز دیک الق شيل مرجي ہوا ےک بسا کے لے ا ایک ات ا تھا اون سال خر ۶ 
وی کے ہیں )توان دوضغتقں میں سوصفت تلاو لول پئ کیا۔ 


وم امم 5555555555 595 


غ وي وف ال ضاوي 


ع موس هرن ۱۱۳۳۳ ۳3۹۱۱ ہہس کٹ 3 
چواپ(۱):-هان ذکر ماد ےحاظ سے ے اور بماد اتپا ر سل ق رآ ان می رز رمک طور 
بات اال لے نز لكباأكر سفت زا یی -. 

چوپ( 6 بندوں بابش تھا یک ى كا ل "تمتو كا طبار بز یح ريل لك نر رعق طور ی 
موا ےک اتال ق شق طور يرا حل فت تی لكا كرمنا سب ہے۔ 

لفظا لف قا نک یت :بج رں مل اففاق رآ بھی ہے جوقرن سے اخوز سا نیرون 
»با راء سے ماخوذ ہے جس لکا تر کر نا او رجا و کنا دوو ل ط رع 1 ہے۔ اب ف رآ ن یا 
جو ول وج ے اور وم ی وچ ےکہاجا تا ےاورضر قان لانه فارق بین الحق 
والباطل او لانه متفرق فى ثلثة وعشرین سنة . 

كيده:_اضافة عبدالی الضمیر للتشریف اور گرایتضور ده ابيدادب کے 
7ئ كتلط تکرب زا تکا ادب بی كنا م کے ہوتا 2 

سوال :تما صفات میس سے مغ تکبد ی تک رکیوں اف رکیا؟ 

چواپ :-(۱)پاری تال نے لیلد الع راج کے وات دگل فر ا ست ہے اسيئ عبی برس 
الفاظ ے یار ا ےا و فی صاحب فى اق ابال رآ أن سره عبد ہکہا۔ 
چواب(۲) :نورقل ترام مفات ٹیس سے بتر شت رسال داك 
و2 ہو ے قمام صفات بقع مرق میں لیکن جب العف تک مقبل رعضتعبد یت کے ساتھ 
تاا ربت هض بد مت لیگ رسالل تک" انصراف من الحق الى الخلق 
لصلیغ الاحكام ایتک سے انصراف من الخلق الى الحق اور ظا ر ےک 
هراتس نبت امراف الق ے۔ 

للیکون للعالمین نذیرا الیل :يلو نك لام یس وال (ا )تعیب 


953 5 5 3: 3 6 355 555 535 


افو وڪ دآف ہیں کو ہج ۲ 
(۴) برا ضایت۔اگر یلام تتلیلیہ ہو جر تز رت وہ 
ایک اکال متا ےس سے ييل اي بيرك پاتتا رو رک ہے۔ 
میا :الل بارے میس اختلاف ےک افعال پا ری تی مل پراش ہو تے ہیں با ھی ں؟ 
اش ترا تک ال ےک افوال يار تنا متيل بل خرائ کی ہو ے وتر رشک طرف . 
انيار موی ہے اود با رک تھا ی عرز اسم ايا سے منزہ ہی يكن دوس ےک حرا تک خیالی 
ےک رافعا لپ ری سل پراش »و تے ہیں - ۱ 
اکال :ان حضرات کے نہب سمط لل جتن کے ہاں افعال با ری تی فی محلل ال خرس 
ی میں الیک اشکال ہوتا سح کرجبافعال يار تی مل پار را كيلو لیکون وتیل 
کیا عل تكيول يناي جار ا ے ما اك تن نل پا ری تھی ے۔ 
جواب:۔ خرن سك دوق ہوتے ہیں بيجا ف شک اقا ول يلخو ضح یکرت 
جاور فعل الحكيم لایخلو عن الحكمة ( ول کت الیل ہوج) 

ال جواب سے ہے بات معلوم ہو کہ ناور« پا نونکا تو لکر نے 
وا ےکی ایا کیا یکر ست ہیں اور در ات فش کاس تک شبات کر تے ہیں ۔ 
(۴)لام فا ی تکابھی مركا نتن ام سک تام عا نس لے نزم( انها مکی اطلارئ 
دی والا) ہے جیےاںٹمتھاٹی كولس ے فالدقظه ال فرعون ليكون لهم عدوا و 
حزنا اور ایک شا کول ے 

لد وا للموت وابنوا للعر اب 
ليكو ن: ی رکا مرت فرقان ہے ياعمدهيابارى نا لی چ ں کن تول خال تیف کوک 

اگ تال ےا ب قيفي ل سے نہ رام پا رل سج اورعرتعبده موتقا کی نای رآن ٠‏ 


وو و و 215 2692852582825 


اعقاو کلف الیضاري 


rE‏ مھ فوویھویویوویوووس روگ 
ید مول جل یکرت هرن میرم نيا ےک قو له تعالی بشیرا و 
نذیرا اورم فرقان وا کون ہنا بوا یکر مل کے بوک اور خرى روا لول 
میس فرق موك لاك عب سرح مو اسنا دسق موك اوراكرفرقان مرخ ہو اسشاديجازى ہوگا۔ 1 
للعلمین :مان مسر اق جتن وض جک سل کے مطابق مارم 
خی دووں سك ني ہی ل کیوکگ رای شزا تفن ےکر خصا تا نونک طررعصاة ی 
آ گ تلع اب دبا جل کے یی اک ہآ یف رآ ني ے لاملان 5 من الجنة والناس 
اجسمعین باق اران جنع یش جا ھچگ انیس اس می وال ہیں (۱) یتنس نع را تک 
خیال ےک ووی مو نکی ط رع تنام لذت بيد سح تع ہو کے (۴)ا ڑکا تول جنی ںو 
بو ليان لذت فتناس ون ورد تك موك ( )ان کے لے يبتر بين انعا م كال ےک انو 
م سے جات دک جا سے چنا ماب رارجنا تشم سے پناددگ كونوا دراباکدیاچاوگاں -- 
بل نذير ١‏ : لفظايا و مص در تق انذ ار ہے دی کیک سی مكار سے اس وت ا لالم زا 
دكا ل زيد عدل کے يفعي ل “تق اسم فائل وكا نذی رج منذر- 
:بکرم مرک نون ا رورت نم یلوکیوں ایارک گیا۔ 
چھاپ(ا):۔ بترا تفر مات ہوئے بار تھا لی ےکی نیمضت نز مر 
ت یراب قم فانذر ای لئے خی صاحب نے صفت زانرف 7 

جاب ( ):۶ قلا ء6 قا فون ےک جاب نفعت کے متا بل یس وفع راخت ہکن لول 
ہےاورصفت نز پیت محرت ے اس لے لاتب فر ات 


ےق جو رق 


جوا( ۳):-لعپارت بی ے فسحدی باقصر سورۂ بس سے محارض کن 
اللا روپ ستاو رکا رسك مضع نز رای متا سب ر 5 


© © © 5 53 58 8 5 5 ا 3 5 5 8 8 2 ا 


اغ وي فت ر هاري 


29 مووه مهو وه و همه ووه ون 20 660909 229608989 


جواب( ۴):۔ اصو کرام اش كن رل مقرم ےی بالقصائل سےا بل نز مرکو 
اقا کیا کعقا تد باطلہ اغلاق رذ یلہاوداعما لتیجہ ے انان چا راما لكر نے بع ر ل 
تل الد کل بھی ہو جا کی _ 

#اب (0):-بشرخاض سے مون کے لك اور نز عام سے مونشن ولفارقام کے لے ٠‏ 
فا رکیل انان الغو ل فی ازم اور مین کے لے انذارشن الا جن درجات اس اور 
صوفیاء کے کے انز ار امكل زول سے شی نكا راب مطالعہ مال رب دتم سے مال کا 
سپ بح باق اديع اكوم سك لصفت نز موا یا کیا 


1 


| خی بافضر سُوْرَةٍمَنْ سُوَرِه مَصَاقِعٌ الحُطَبَاءِ من الغرب العرباءِ ا 


4 سد دو و وج ہے سے سی یوعد مات کے سے 


ف وت ٍ0 عناص رس ليرا | 


8 
"اھ و حم مَنْ تصلی لِمُعَارَضَِه من قُصَحَاءِ عذنان 


کی وا( تست )بل ىده ادمغامو کردا اش وس مر کوجواس | 
(iA 7 CL 2‏ کے امار 1 سے واقیلے اا a‏ 8 


اونلفء ف خطان عمی حَيبْوا هم نجوز تشجیوا ۱ 


ہں ع ع تج ات سد دس 


| ید قطان کے يأو لل ست کیان بول نے اس پات کا کا نکی کرد هک مک ده ی | 
را :اس ستل صت جس تی لیا نكيااددال عبار ت ش از كيان ہے 
تر :مت تفیل بعداس می اتا ق رآ لاو رق رآ نک قد یکابیان سوم یرک 
رن ہی رک سورقال میں ےکک بھی وٹ سورت کے ساتھ بت بڑےنطابوں سے پارگ 
تیا نے معا رضطل کی ناو ای معارضہ در تما 

فا لغوق:_تحدى حددے ےک كان مها راوت چلانا اتيز حل 


8 ق 8 218 5 5 ا 8 لق ث8 28946862 


۱ الغ ا وي كركف |لضاوي 


ےر سے ہی ی ی وو .ل 
اصطلاى "قی:_اصطلا ر بل تحد یک ن طلب المعارضةعن صاحبک باتیانه 
بمثل ما فعلت انت ٠ ٠‏ 
تر ىك شیر كع رتنع میس روا ال ہیں را الى اش ہو ای الہ ای رکا مرح فور ' 
الث مولا ر کیپ وی ال فیک مول 1 تسحدىكا عط ف ل برعو او یر را إلى الموصول 
(الذی ) موی او راگ تی را جع الی الح ر موتو اعت راض ہوسکتا ے۔ 
اكت اش :ال وت تحد یکاعطف نز ل ہوگا اور بيش متطوف طوزن علیہ نے نگم میں 
ےچب کہ بیہاں “توف عل شیر جع الى الموصول رون می ہیں ے۔ 
جداسب (1):# ار ت کات دسل یا نرد ضاط الذى يطير فيغضب زيد ن الذبابك 
۱ تل سے ہجےکہمہفاءعا طف ینیل بلک فا سیم اسل فی را تع ای ال وصو لک ضرورت E‏ 
ن طی ران ذ باب بب_چغضپ زيرك یع رخ يبال گی تی فرق نق رک ور کا بب ہے۔ 
جواب(۴):۔ جب دومملوں کا عط ف 7ف فاء کے سا تير مولو دونوں ينول تمل واعره کے 
ہوتے ہیں اورایک مل ماخلا فرت جا ے۔ ۱ 
٢‏ باقصر سورقمن سوره : -یآیت ترآ فاتو بسورة من مله سے باهذ > 
جس میس سور ڈک یتو ین اقصرپپدال ہے۔ من سور هك تید ےہ رغم رآ فى انراز 
و دسر یکت ب ساد لسوت جن ان شلقرآن جیما ال سس 
سور :-اصطلا می سورة کے کمک اس مقدارکوج تخل مت ہو اور از تین 
آ بات شقل ہو رشت سور ابر سے تج سورالبلد بہت سارک نزو ںکوگییرے ہوۓے 
ول ہے ای ط رع سور تق بہت سار ےعلو مکوگییرے ہو ے مول تنا 0 ور 
مرح سے اورسورة ايك مج وال جز سب - 


5 81018 5ه :8 2 هو :2 ا :ا‎ © 158 143 BO 


الأظ ل وي ف ركفي الَضاري 


2 
مصاقع الخطباء : -مصاقع ے مضفعکی تمن برت عارك .ال کو دو 
مت( تع ,طيغ (۳)عال ااصورت, بلنر؟ داز واگ صقع الدیک مر 1 دازو 
بلنارکرنا۔السخطباء نیبب ن‌البلیغ المقدم من الاقران فى المحافل 
والمجالس الہ مصقعکااو لع مراد و مصاقع ک‌خطیاءی‌ط رف اضافت :اضافت از 
کی موک لیف الاسد ے او راگ انی محق مراد بو اضاقت العام الى الس موك بحس اصول 
افق نبل اصول عا مکی اضافت فت نا کک طرف ے۔ ۱ 

امن العرب العرباء : تاکرب ٹل بوک جب کنا 
کی کیہ نی واو مذمفت شب اکیاری جا نل ظل ظلیل اور ليل لئیل كاز 
يتبال يج لفط عرب( 3 الراء) "یت اورعر ۲ لون الراء )تش کرک لئے ے۔ 
فلم يجد به قدير ا: _قدير صخ صفت جل ل مبالغموالا ”قي موتا سه 

اکت ال :۔ جب بيصيخ یف تکاہواٹس بم شق مراف کا زاس كهال تہ رة اورمبالغ نی 
القدرة کرای مولس تہ ر وای فو مول مارك رقص وف تر وکا یکرم ے۔ 

چوا ب( ): ت اد ہے ایکا جواب دیاس كمال ی فت می مہا کل ہے 
کول مالک مت اه عشت تسب ے توہاب قعل ے٢‏ اور قدیر اب قعل سے 
نبال جن زادونے الک دی ای ےک باب فصي صفت می مہا ای لے ہوتا 
ےک باب لی کال ے ازو ماحل لنفاعل ہے اوراز تل سکس 
جاب (۲) :ولو سلما ار انی نکیا می بائف ےا جواب جےکددو چ زی 
> »ول ں( )الق السلب (۳) سلب ن اہالف۔ یبال اول مراد ےکی جات یش ے۔ 
اعت زاش :ب فلم یجد ل عدم وجرا ن قدير جع الكل عدم وجدان سے عدم وجو مدنا 


9:14 © :9 5 1 © 519 مج موومووووهه ۱ 


0-0 سا 


و صجو ه و دون وع 2و ھ8868 65 25335 ۵ 882-8 222٤۵82158‏ نت 35 3 

كم ل شرورت عد م و جر رد ے۔ 
چو اپ :تلو كاعد م زان ار معدم وجو راو میں انان عدم وجدا گن عا انیب 
ناولم سعد م دجو رف لواد یہاں لام بول یلوم مرادلیا سے اور کناب وکوک 
عدم وجو وقد كا جا ل روسل ےلعد م وجدان با ری تھا ےا يقينآعدم وج رند هوک - 
جلو افحم من تصدی الخ :_عرم ت ر بالکلیراوزنہورعدم قد رتکایان ےک اکر 0 
نے معار کیاکی اڈ افحم دورسواہوااورد ال کے سا حے روسیاور با خواوو وشیا ءعدنان مل 
بابلا قطان یں سے میم فحم سج لكات كل جاور افم کاک اه 
یق تج پکراناکہ ستاب لک نوا دكش سارى سے منسیاہ ہو جا کے شی لا جوا بکرد یناد 
وناغ قحطان : تن الحرارة ےی ایدو تیه ہیں :اعد نان ےنا ع فی 
اور قطان سے تع( جرب نہ ہوں پل بنا ك کے ہوں )مراد ہیں- 
٢٭حصی‏ حسبوا انهم سحر وتسحير ا : كامس نے انائھان ظا یاک 
هکم جادوكي كياج اود نهاك نامعن اس ل ےک یا یسل مسق کر ے نه 
قران ی ار تیا یکا كلام سے کی پش رکا لا میں ۔ 
ادون قران بی کے وج ايان ہیں ان مل سے چندا ہم در ذل ہیں۔ 
اس می پیش ردان للغيات میں جلي ہیں۔ 
(۴) قران مجر کے مضاشن ل اخاا فأ ول وکان من عند غير الله لوجدوا فيه 
اختلافا کثیرا - 
( ۳ )وب کلام تیب کاس کالما تا ب كبس لضب کے وات کے بی متا 
وت رت مکوزکرکیاجا تا >- 


2 8 55 6 55 ها ها اس 5 5 6 936 868 


اقا وي يرقف ايضار ' 


سی EE‏ رو کو پت ی سا 
(۳)سب وبتوو اذ نمل سے الكل وائ قران ید وچ ام زاگ فصا وبلاقة سے 
زا-1 پ کبک قران یفام وبا غر ی کی وج سے مججزہ ہے مالک تام 
فصاحت وبلا نت مون ے جوکتب میں درج ہو جآ دی تنب تم مغالى رعاوی ہووہ ای 
ران یر ى كلام بنا نس کلم بای شی رک ہو ےکا مطلب ہے؟- 
جاب (1) :#فصاحت و بلاغ تك تف ريف ب ےک کلا می تی وال کے مطابقی ہو جس - 
یس متقضیا ت احوا لکاعلمضروری ہے انسان نا کیم معالى نٹ اراس دا ٹس ر ہے 
SEE E‏ نون کے احوال ح واف نہیں تو ی احوال یں عدم 
ی کی وج سے قران یر یکلام قم تال بنا کک اور با ری تاکز اس ليم وي رفانت 
ں قام احوال ظا ہرہ ولیہ ی فو یق خض یا ت احوال تبيخ النا کم ہو ےکی با 
کلام یش یشک ہیں۔ 
جواب (٢):۔‏ پادی تھالی جس ط رح ال ذات شی مفردو بے عثال ہیں ا ىطررصفات یل 
بھی بے مال ہیں او کلام اش اش کی صفت ہے اورانفراد یت ف الصفة اک ط رع موق ےک 
یکت تال یکلام على در کی فعا حت وبلا غت شا تل مو ہب ہت 
شم ناس مال هم مم عم هم ین نضالجهم بر یه 


4 ران کیا کیل کدی ان تب میں | ۱ 


وید خر ول لیب مدير فکت لهم قاع نیاق عن اب 


ae ms a aa ya aa لا‎ 


1 | اور تغل وانے تحت کپ زین كول دان كيه می رگوں 2 ردو ل كو ان آ یا ت یات 2 


لست کس ھی ھی ےت کے سس کے ھت ل ا ا 


۶ تم وور 


کنات هی أم الکتاب وخر فتتابهات هرمز الحطاب الا 
| ام الاب ہیں اود دوس رکی آ بات تنشاببات میں جو خطاب غدادتدى کے کاک یں تاوما 


کت 17ج 5ع ۵ 5 ف9۱ ون 


Ey ا‎ 


دن E E E‏ و 


۱ تست ماگ شرع رس ہت 
۱ سج عم 


وَمَهَدَ هم فراعدالاخگام و آزضاغها من نصوص لیات لماع 2 


شش مس وو ا او ال جو اورک 


e ۱‏ کی بات اورا شارات ات سے ترط بل | 


سح ہو تچ ور 


اچ ہر شش ہس ہہ ہش شر یش شر ہیں 


وهر قوب هزین وة ما لے ہے 


مر ر پر 


رفا ال یت وي سیا زیت لود 


دس سس 


ase ses ms ema a E ree oa re e saran met va a rea wi a rak e e e E RS mag a mm na ami 


` 


00 حل جوان کل کے اور 52 ١‏ 27 
ےآ پک مد دیپ کے یا نکر دو اک تارب شور ی ال کات ے دم تكايضان 3 
ژاشلک بنا مَسَالِک کرامایهم وَسَلْم عل هم وَعَلْينا : تَسْلِيْمًا كيرا 


اور یں بل ان گی گرامات کے را ستول چا اوران پر اورک ع لاق ذل فالخ د 8 


20 


| 5758© 815 5 8 5 2 5 553 5 یرس 2 


<- 


اغ وي فک ركفي التضاري 


سے میس O‏ 
فا کرو شف عبارت او اخ اق مصنف جیا نکر ے وقت جرا جانا ےک فلاں لفظ عفلال ‏ 
کال می غیت مغیا سے نارح ہوی سے ببوضاحت اس لج ضرورکی ےک عالط مول 
ارا معنف :ثم بين للناس ما نزل اليهم سے قران بجيدك ارشاد یکیفیت 
كاذل ج»فكشف لهم قناع ےثم بين للداس بغر جعوابرز غوامض الحقائق 
ولطائف الدقائق عأ و یکر )يفيت تيا نکابیان ے لینجل ےعلت ابرازكابيان ‌ے۔- 
ثم بين للناس مانزل اليهم : ۔ یہاں سےقران میرک ارشاد كبفيت زر 
بات ہی كدير ان یکوک رش ر ورای تکاز ب ہے ے؟ بین ک رارت 
عبده مرجع لفظ ری بسنا سے کان وا سط یکر یب ہو کے 
۲حسبما :کی موا قي ع عن ہو ر تی میں سمل ہو سے مطلب ہے 
کہ ری یک ریھگ نے لوكو ںکی كنول کے ب نظ رق ران بر یا نكي نم رورت 
لتق ايان ے ےکر نس مكو فک رک اشار کرد كرتا بیان ان ونت نطاب 
چا مس با موتح خطاب بل استرارئ ضروزی سے کمافی القران فاذا قرأنا ه فاتبع 
قرانه» ثم ان علینا بيانه . . . ۱ 
من مصالحهم: ال ٹیل اختلاف ےک بارى تلاکو کی مرکا کر 
واجب سے پا یں ؟ من کا مسلك ہے س گرا رانا سكا حا اك رنابارى تال م داجب > 
اور ال سن تکا مب ب ےکہ پارگی تقال انو ںکی ماک ات فرماتے ہیں نیشن بطور 
تفقل اوراحسان > _آیان‌ضزل حسیماعن لھم من مصالجهم تفلک 
٢‏ لیتدبروا آیاته: - یہی ن تاق نب رانا مکارکدسو ہکان م سور سیب 
جتن كك اس لج مل کو کر مر مکی کی کرک امقضارواتقاء ' .یه کے 


8 8 8 6-92 0 0 5 5 8 69 68 606 


زاوي يكرك اي 


0022920250626002 9090و و 9و و و 9و DS‏ 


برع تكاحصول اوراضچا کا ا خضارہوتا نا 

٢ل‏ اولواالالباب : لفط تالو هدى للمتقين وال سك طرف ارو موكيا 
کار چ تبیسن ون 0 ان تلاصا يتقو لكو ل ہوگاء تيز نی 
اشا ر هكردي كاسما سيقو ل وی ں ون بر کے بحر كرعس لک ے وب - 

بلق کیر ا: بیع کر ول طاق موک کر کے ن ل هاور وتبتل اليه تبتیلا کے 
کی ےار نظ :کرای مل ےکی الہ ت ذ کر لازل جاور تذکیر متعرق ےاں 
مورت ول قباس چاو رس زد ےکا کہ ت کیا اذل 
دل ےاور یرال ونت مال ۓگااو لواالالباب ے ای جال کونھم مذ کر ين للغير . 
٢فکشف‏ لهم قناع الانغلاق الخ :۔ اہ رکی ضط رپ يارت ثم 5 ری ےاور 
حيتت ب عطف انل می امل ب عپار تچ یکیفیت دلالی الا کا کا بیان ے؛ 
کشف کاس ےازالة ما يستر الشیء 

جو قناع مقنع کوک إل تل سےگورت اجر سيج رساود وذ ها بق ے۔ 

۳ انغللاق : وغلق “ن بن ركرناايات محکمات کاس میس اتال ناشی بالرسل ہو 
قناع الانغلاق کی اضاف ءال لجین الماء کے ےن اضافة ا ہبہ برالیالمشیہ ےن ہے 
ہوگاوہ انغلاق جوقنا ع شل ے۔ 

اقترا :ج با گام نسل میں تاو وشن کا خا لک دقن هراس سے يرد 
سسکا یا ملب ؟ اس سے معلوم وا گرا نآ یا متكادات می لک مكاانغلاق موجودتھا۔ 
جواپ(۱): سگم اص ےک جس یس اتال :اش پال رمل د ہو اس میس اضالات 0 اضر 
رلک ہیں جوامکان کے درجم ہی کلف تال تلا کاازالے۔ 


12 8 33 2918 12 1217 32 18 48 5 37 15 115 15 17 518 


۱ لفاغ وی ني نفلا ليَضاري 0 


© 5ه ج26 © © © 720 © 5 515 5 © ج 54 54 0 وه 5 © 62 26 22626 و 
جوا( 1١‏ ):- با اوقا ت ایک جز حت قب الو جو دک شقن الوجووفر شا کے اس بتكم اد یا ات 
سے كما فى قو له صق مم الو كن ب لكا منج گکر) ہت زاء س ےکوی لكام دبك بنا 
ديك پیل نض ل کے بعد می نگ متا بانب ےک بار تھی نے اي كلامكوابتزاتى 
كام بنایا۔ 

ير بيبا ل عباداءت میں چنداستعارات ول _ 
فا ده:#استعارات چام ہوتے ہیں (ا)مصرحہ :تمل یں كرعشب پر ہواورارادومشہہ 
کا ہو( )مکی : وکر مش ےکا اراد وی مشب ہکا ہواورمش ہک تشر مشیم ہہ کے ساط ضرق تفس ہو 
(۳ )تيل :عشیہ پر کےلواز مات بل ےکی لا ز كرعشب کے ے ثاب کیا جاۓ (۳) شیر 
مشیم ا ا قر وود و ام تکیا عون 

اب ال یا تکوش زا دنور از 1 سے ہے استعاره ملي سے پر 
انغلاق جوکرلازم ےا کانبات استعار یلیہ سےاورمناسبات ٹیل س کش ادبم تكرنا 
استارد یی ہواء ای طط رآ یات ما تعر انس مصحجبہ سا تياد ے ہے 
استھار ومک ےپ رقا كنا بتكي يليه او رکش فکوخاب یک را ھی ے۔ 
۳ تاویلا وتفسیرا : جاه لک جارعم بی سکاف ات اضات کور یهلا 
7 عل لتق ل مو رکش ف كير ے مال ےای حال کون مژولا ومفسرا . 
جہن ام الکتاب : وه اگما تی ام اتاب بل بوگان يرادا مکادارویدارے؛ 
رات فر ایو خر متشابهات تتاب ہا کی یں ہیں( )ج نکالفوی نتو معازم ے 
يكن م اعلوس تيب يد الله ببوم یکشف عن ساق وفیره(۲) افو ن ىمعلوم 
یں ارم ر کی توف تفت الم ملس من ق درد 


0 هه 8 840 180 2585855058 ` 


الغ ري ع داري 


6 00528900 66 260855896800099 © 60 500 8866 98 28 ۰ 
بل ہن رموز الخطاب : رموزي رهزل ن مشو ل اورابروؤل سےا شا وک یبا 
احم ال ر امز کے تو بیس ے۔ رم زخطاب ا یکلام و كت ہیں جس سکوخی کی ط ر فی کیا اس 

اکل عار یلیل ے‌هن رمزات من اهله رمزاخفیا من الكلام الموجه . 

۲و ابرز غوامض الحقائق ولطائف الدقائق : یہاں ےکی فی ت تي نكابيان 
۰- اب رامق اظہار غوامض ا غامضة کی شع ہو قافن کےموافن سے اور اھر غامض 
کی جح ہو قافوان غلا ف ہو یکوک فاع تی کی جع فو عل کےوزن پنیا سآ فى بال نعل 
اک فوائل کےوزن پآ تی رق ہے۔ غواسض السحقائق سے مال شمہاد تك اشیاءی 
طرف اغشاردےاور لطائف الدقائق سے عا فی بک با تمل مرادہیں مطلب بر ےکی 
ا رر 
وم ے احا لگ لا ے ہیں ۔ ۱ 
7لیسجلی : -س عل ابرازكاييان ے۔ ملک وملکوت سے ایک کی مرادت» 
ملكوت یں مال ہے ای عظیم الملک :ای 2 آقی رمام شبادت اورلگو کی 
۳ یب کے سا لکئی ے۔ 

۲و خبایاالقدس والجبرو ت لاتم بیادئی کے شم کے بل 
ایک ںآ الق ری کے بعدوا كاذك عاورالجبروت ‏ القدس برخطف ےا ير القدس 
سےصفات مالیدادراسجبروت ‏ صفات جلالیرمرادہوگی او رک نز یل قدس غر حرف 
لضاف لسی الجبروت اریت یک صفات شب النقصان سے 
منز عا انا فو کی صفا تک طر نیل ہی لكوك انان کے جلال للم ایا ہا ےکن 
بادك تا ی کی صفات جلالیہافراط ر پیا ےرہ وکر معتل ہیں۔ 


3 53 515 5 55555 5555335 3 


اغ را وي نح دق ار 


9 9 © © © 563 5 © 5 600004 66 66 25 هه هق 64 © و جج ۵ 84 2665655 255ھ 
۲ لیتفکر و فيها تفكيرا : عل تکایان ےابراز غوامضكىعامت انجلاء خفايا 
وخبايا فی مرا سك عبت ےک انان پور هس کی سعادت دار نا سیب 
ےچ تق رکر میں او مصنوعات بار یکو وک ھکر شا نت با رک تھا لی يراس دلا لكر ینگ اور 
ج تست شان يارى تھالی براطلا ہو جاۓ گیا ظا شع لک آ سان ہو جات گا اور 
اکن سعادت‌دار بق هل موی وی شعو رول وی عدب 

۲ ومهد لهم قواعد الاحکام : ۔ یہاں سک كفي تي نکامیان ہے۔ مھ دن 
هيأ ارلیاءقواعد قاعدة یئ ہے۔قاعدہاس قانو نگ یکانام ع جلف جز تا تم 
تل ہو,احکام حكمك :تخ ماثبت بالخطاب تب ہجوب جم ندب وتروب 
7۲ اوضاعها : -اوضاع وضع گنل ا ركام 

۷ نصو ص : نص گ سج يبال رید کے اج تی مرکا صرق 

جل الما ع: لمع کح اشاره .متك اتا لی نے فس رین اورفتها ,وی افر بای تهون 
نے اتنب كي لورقنام اکا کی خلت لآومتلو مکی انض ا تذرا وص رع آ یات سے ٢و‏ ے کے عيارة 
انض کے میں اورٹتض انا اشاره جات سے »وس اشارة أن سکہا جانا ے۔ 

7۲ لیذهب عنهم الرجس: -نزل الفرقان سے اب کک تھا باد تک عل کاییان کہ 
اللو کوک پا کا م نرق جهال تيت هال تاكتك مول وال کر ےلت رؤب 
سے تصف ہوتے جب یکر کے میب د ہے او لکن كاطر یی بای 
اب جرا رل ما بالا وكام وک ران بر عائل موك الح پاری تقال دوفو لحم تدبو ںکووورکر 
ےگا جب انان اک ہوجا مشابرة جا ا للا لکر کک اورک بد ىكاميالي ے۔ 
فمن كان له قلب :يبال ےمان وی عا نک اقام کیان ےک لین نے 


ا 5۵ 55 :7 3 5 218 83 855 


تفا وي نف نف قاري ۹ 


د م مم ا ا 8 و 
اکا م نکران لک كيان افر فمن كان له قلب ءقلب نمی ہے ای 
قلب کامل وعظیم من الاغراض۔ 

اورووسری ام دو تولف گل نکیا ليل نمل میں بجبرنتصان تھا ا نک ان الفاظ 
ل كرف رابا والسقى السمع وهو شهید ای حاضر النفس كران دوتو لک مان 
فر ایافهو فى الدارين حميد رای محمود فى الدنيا ) وسعيد (فى الأخرة) 

۱ ترا وہ سےجنہوں نے يالك لت کی بن جعلوا اصابعهم فى اذانهم 
كاعد راق ۓ ءال کوان الفاظ ے بیانثر نایا ومن لم يرفع اليه رأسه واطفا براسه ان6 
سو يعيش ذميما رای مذموما فى الدنیا) وسيصلى سعيرا یع شکوځز وم ذکرکیااور 
سیصلی لجرو زک رکا ا کی دہ ىر کہ یش اش کے تب کےطور پہ سے جوضرور ىكيل 
او ین کیری دنل س کا رت یں وقول شور ۱ 
فا واجب الوجود: - اَی راجت وود وج ہار تعالی کے بت ری لصف 
نے جمال با ری تھا یکا مشاہ وک رلیاے اس لے اب پارگا وا دی میں حا روص عى انی 
پچ کی دع امررے ہیں۔ 

صلو جع نی جال کے دن میں سےا نعل اس تق مت 
لک ذ كرك یل یذ کرک بھی ےکا لآ یتکامطلب ے کرت حيسث 
کرٹ اوراس سل ريل شكرا لمنعم و اجب عقلا والاضابط کول کر 
مار _2تصول فشان بار یک واسیلہ ہیں لبذ ان دو وليلو ں کی وج صلوج على می پگ 
شرو ری ہم یل کت رات ری س 
#٣‏ ويا فائض الجود :فائض فیضان سے ےیک رونا کہا جانا سے فاض الوادی 
ج بکناروں پر پا لی چلا چا سے اورا صطلار) ناسا سب فَعُل فاعل يفعل دائما لا 


هو سی 5۵5 595 55 555 


اظ اوي نف اهاري 


ہے سمش ھ5 
بعوض ولا لغرض ۔ جو دک ن ےافادة ما ینبغی لمن ينبغى لا بعوض ولا لغرض 
تی مناسب چ کا فده هنا سب مہ هن کوش وغ کے !خی رمشاک نیکست 
ا کے کے وقت ا ورول دےد ینا او ٹیس ہہ اک ط ری جام لکوبیماوکیشریف دس 
دای البق ان قووظا رین - 

غاية کل مقصود :من تقصووامل ومر یل علا نہوم ہے ےک صلو وج 
1 گر ماپ ب الست وای سلو و جوساوى موان کے فا ده اس کے اور بدل سب ان 
ل مظتنت برداش كر فك اوران شہوں نے یکره کی اعا یک اور بیان نیک ی 
جامد يبنا كر کی اور لت ا نکی بركات يلل سے تصرعطا مار ہیں هلا ا نک یکرامات 
کے راسوں بثك اس ارت پک ہج سےا عفرا تاو تہ 
057 70ط" با 


swan anna‏ سا مت ری سی سا دص رو راو سح می پیج لہ عضوم منج سس سح ال جا یی جب جج ما a E‏ سح سس سا مه مطحي جم بد یرد :انی اف وی a‏ ہے ہیرس و ارت ھا 


تي أن ب نا د ل ی ری سس ی ع اد ری ی یس ی ی ی که یوک ل ع مه زا ی یمیلع ی یی ی دا کم ی ی ی اس ايه بع یا زد و سس هی ہش 


۱ سس رح 
_ اش نتباك وو شير وج _ 


هویش للم ال سر َب قَوَاعدُ لزع و وَأسَاسُا 2 


n‏ سا تعسو جح ا ای وه وو سس Goni mu u ut ate e en i‏ سس a arme am a te‏ تست س رہ دی ت 


ساسا تس ل ےجب ہمہ کے وش تاد ماع ات ھت سا ا 


وه اق لی لاعت الولف أي برح ران 
1 اور ر ام ما مناعات تك گرم ب اور فون دبیم 3 اہر و - اور پا ا اوقات تک ممرے دل ل ی 


9 59 919 2 5 9 © 09145 24 © 09 © 0 2 


اغ وي داري 


کین یٹ شش شر شش و کت 


ام ماص موس 


0 maman nr احاح مه س سد مد جات ست سد سج تست هت یی ای سس ساح ححا سا ساباب كات ب يجت ص‎ ١ 


ات بيدا ول ی نہیں کان ہیں ایک اسك لاب شی رول وھکل ان پر ال مل تو ہیں 


هش 7 وَعْلَمَا ده تن یت الصالحین | 


2 سور ساد ا ها 


موت م میں سمش EEE‏ س ت س ی س ص0 -- 000--0 ١‏ 


نوی خی کب نع نیت فد شاه اوتا کی 


ساٹ تر رش ی ماح حت صاب عع سر هه یس خی هی سا ست دی و تد ا ردق ا مج 


ا سك بقل »ویب ور ۳ یتو باورا يسنو ۸ لئے /* 0 2 ست اکا اور مت سے کے 


18 
3 
6 
9 
7 
۱ 
GC‏ 
%4 
کے 
٠‏ 
اہ 
۲ 
3 
00 
اج 
5 
۲ 
و 
ا 


ات یس تس سس يه سس ا د تت ع م که ل ا ل ا ا ا ا 


َفَاضِل الْمَُأَجَرِيْنَ 90ص 009)] 


رجہ ی سد سس رم جات سر وت ی هک ت ت ت ت ت سر eam mae a‏ و ہج جس پاپ mnu mme‏ 


9 ماز ن نش , او رمع تین سل اور وه ناب اك و وه قراء اتہر وره کو اہ كرد سك 


يح ی وه e‏ سب a e‏ مر رد با یی سد سے ہے سے ع ہے ہے جو له ل وي 


سسجت 


غاذه ۳ 


و و 


ر 27~ مه 


رة ال 


غ 3 ۰ 
| ج ألم بور كد رف کھت إل اور قرآات 


لص حت ل ماص ص سس جح کے مصعم جاجح صن لجيج حت سس مسح صا ص ف هت صن نا یس مسي وه عام ہہس 
سے 
f‏ 
1 


0 مل سردي مال ۳ ولغ یت 4 


7 سے 


ی لیم ر ان بت نآ اسف 
اس جز کش ور کر ب لكا ٹیس نے اراد هكيا ئها او دای جز سك اانے بش كال نے فص کیا تھا 
یہ م نيت ک نے لال کا کیل گر ہے از 


س 
۱ 


۱ سس سس 


ےمد ده مس سدع دس و مھ سج سم سل ماس مسج و سو ا سکم موس 


جج ۵ و 0 9 5 :8282 388-4 


اغ ري فص ركف الضاري 


eee,‏ 1غ 
نَوْقِقِهِ اقول وَهُوَالْمَوْفِقْ کل خير وَالْمُعطیلِگُلِ 7 1 
E‏ س ےکا 52 اور دی تنل نے ولا > جلا کی اور عا 1 وال سے پرسا لک | 
راشف :_فان اعنظم العلوم ے لا يليق 07 ےاورای 
سن من ما اکرش کرک اکر لا بلق لسعاطیه سته رطالا کت 
معت نكوي نک غير ممصن لیا ہنا پا :مر وطالها ےیحتوی کت 
تصني فکواور یحتوی ے الا ان قصور بضاعت یت ککیفیب مسي کبیا نكياب» الا ان 


3 
أ 


قصوربضاعتی ےآ تر لکل مسئو لک تہ عل تصني فب تل تفس صاش ے۔ 
شرنو بعد کی چ یی ہیں( :ا كابترا تفر نے والاکون > 
( ۲ )اتی نک :ا کشر یمیا ہے( )تیاعر دبنائی(م )تی كي (۵ )فط بعد 
کے ها واوراتطابعد سے پیک وا تن( ناقری 

0( مین فى :بن اس دمن اول( سب سے یا سک اکرنے وال كان 
سال ملق اول بل اشتلاف +( )يقر ب بن فڑطان (۳) نش اعد( ٣‏ )کان 
بن وائل(۴) حضرت داؤ دای ۔ اکٹ رات کے بال بچی را ا کی دمل بیدی ال 
کہ بار ی تا لی ے۲ ل یرس کے راو راکو کا کر مر نے ہو ےرا تله 
الحكمة وفصل الخطاب اورا ل فصل الخطاب مراد لفظ امابعد کاعطا ناس 
نیا سب سے یاس خطبات يبل امام بح رکا اتال حطررت داؤ رای لیا (۵) ام 
رای رم الله فی کیب یی سور لوس نکر سیت کے اول تلظ 
کر نے وا تحضرت لتقو ب ای ہیں - 

( )اعم شی :ا س کا خی بل بنا ست م كله کے درجہ يبل ست گیل قرام خطبات و 


35 55 5 135 2 3 2 3555959553 58 


اوي ي كركف الرضاوي 


25 216 و موه ها :9 وه و و هو و وود و و و :ذا :18 :9 :ا و 550۵50۵۵ 9و 


مها تيب بو یل لفط بعد وود ے۔_ 
(۳( تن اعرا و ينال و ات ال ے اس کے ضاف ایک 
ن صو رتيل ہیں اوران کے انار سے اس کے اعرا بک تين حالسل ہیں (۱) اکر ضاف اليم 
كود ہو ا زوق ہوک رن میا وق معرب تسب العوائل ہہوگا_( ۴ )اکر ضاف الي حر وف 
منوی جوتو على أضم ہوک با وا لک( )اس صورت میس يب یکیوں ے؟ ( ٣‏ )یی 
کون کون لیاسو ن ے ب کی اگ رک ہکیوں ہے؟( ٣او‏ رتس راسوال 
یی ہ ےک اگ راب وفع الھرک كنا ی تھا تو تضم می یکیو كيا كيان على اش على 
اک ریو كس دیاگیا؟ ۱ 

ان یو کہا جیب جواب دے یں( وی بات لمي كال ےا کا جوا بت 
بھی سب کہ چوا یف الس رف کے احقیاع مس مثا س ےک کی حرف ان ب لالت 
کر لک کات ہوا ہے ایی بی بح ترس اسقعال بل مضاف ارات ے 
کے اساء وصولہ اور اس اشا ر کی صل اور مشار ال کی طرف اعقیارج یی ر فق اکل کے 
0ب - اجباج 
کیٹ یی اسو ن ہوییے من وعن ہی پگ اس لقتل بل مشاہ ہی ہنی کے سات ای لیے انكو 
كل اف رک کیا مک اص لن اورمشا يق نل فرق ہو جا ے (۳) تس ری با تک لضعم کون 
ہے ا كا جاب ہے کر جوت معرب ہو ےکی حالت یس منصورب اور یرو ركسب التوال 
بو سب وم بو ےکی مامت می ں ایی ا کیااک حر ب نی مم فرق ہو ہاے 
(r)‏ ین کی :سس تقاق ےک یور يلفط بعد مضعول ف تا ےمان را ل 
کے عائل میں اختلاف چ» اس شک وال نول (1) مرک یکاخال ہ ےکا سے ييل ٠‏ 
شر طم ترون چ دشر ےچ مهما یکن من شی ء بعد الحمد والصلوقٹرۂگڑوف " 


2-7 ها 5 وق جو 6 :ها 6گ ا ا ۵ ۶ت 


الغلا وي كركذي ضار 


oe‏ اااي ی ا و لقي ا 
یش چول ہے بعدا سكامفعول فی ہے( ۲) سبو ييفر اس و ںک رافظ بعد ر فق م مول 
ضا ہے ال جزاءکاجھبسعصد کے بعد رو ے_( )علا ريا ق لقصل فر ماتے ہیں کی 
بعد اء قد ماما ہونا ہے او رگ تیش دا بی جا تم الد كم مونو جر ا کا مفعول فی برا 
سج اواك ر رما ت اھر حم موتو شرب کامفعول فيربئناً سح 

شكال :امام ازن کی وليل ونب کیرک نوی حرا تک ایل س ےک قزاء كزيل نش 
ج چ زی کر ہوا کا رم | راو ایس جا مز الد مم یک کي مطلب ے؟ 
واب :چا النقد كم ہو كا ما بي ےک تفم بر اء کے علاو کول اور اج شر ہواور 
ال رجات الق يمك مطل ب کی وا رع کرام کے علاوداورکوئی ما کی ہو 

جنا چہ یبال میضاوی ش ریف ل #لفظ سعد يكور ے يري رجاء: الثقد سب للم 

ایک بلح جزاءوالا ہے علادوان ایگ بال يق ےک فسان اسظم ل جز اءيرانّ موجوو 
ہے۔ جوع ل شیف سے مابعد بیس لوم كرتا ہے ا ل بعرم لي کل یک مول اس 
سے طا مقر مت م وکنا ر 

(۵)یا 2 5 رقاب هد بحرن وشو چو رولو روجا سے نای لفط ال 
رال اکر ور و قا م متا مشرط کے ہو گا اود ہے فا مذ انی ہی گی او راگزور ہو 
بک شتا بعد بوجي الم يبال 1 ور اخ اما کے سر فا زا موك قز راا اوج 
سے يلتم ماک اپ جلها مایا ہےکہ جہاں اما کاعا لور يب كرموتار بنا ےو معنف 
توت ویس کف کر کے جزاء یر فا ء بدا لکمردگی۔ ۱ 
اکال :۔ا کم اقسلا لیا مطلب ہے؟ ال ےل مصنف کے واكك ہو ن ےکا وم ہوتا 
سح ران تصني فكاكيااعتبار؟ 


58 5 5 5 55 5 ۵ 8 ا 35 3 ہت 


الأظرا وي رتفا اوي 


ا و SG‏ 299 
جواب: .تم اسا ے نوو ڈ م مراد ے ج وكام عرب ٹیس ایک خو لی کےطور بر استعال موف 
ہے۔ چوک ہیی لكلا ع یی پیر ىك دل ہے او ركلا رب میں تمل ای طررح ےک 
اوقا ت ایک لف کا تتا م وتا ہے ا لکوت کر وم تکفا کر جانا ے اورپ تحصوعییت 
تما بل متخ اد ہے بیہاں بطو استشيا دای ک شح ر كرك کے جوال بھی دیا کہ 
اها کے علا و واورالفا شی مت ہم مانے جات ین ریت 

بدآ لی انی لست مدرک مامضی ولاسابق شيئااذاكان جائیا 
بہال ساب قکاخطف مد رک منصوب پ_چمالاگساال رور تیا کی عرب کے قاعدہ 
لك كلها مور رز ربا نموف مول ے كمافى قولک ما زید بقائم2 
مایا زار امقام تھاعبارت نول مدل چا ےی لست بمدرك ولا ساب ق کنا 
ز کار تماقا »و سس ابس قرگرور رکیایاے۔ایطر 
قرآن یرمس ناه ہے فاص وان من الصْلِحيْنَ یبالگی‌واکن بر عطف 
ف‌اصدق وبر ہے ا کی یہ تی 2ہا ت می سے گی ایا جہے عام لو لفق 
کرد بحر :۱ کے مور ہل »ودرا ھال م جاک بناير روم کرک کیا 
فاك تسر یل جیہ:۔ علا مر رماش سذ يبا ل سری‌صورت زک کی ےک لفط بع دی 
راو کن ادا ایبول اورا کی مثا لق ان یش ےک ایک ان شرا 
شمن ہوتا سے او رای جا یر فا جا یداش مول ے كما فى قوله واذ لم بهعدوابه 
فسیقولون ال مل عہارت لول ے فسیقولون فى وقت الاهتداء ۔ 
اختزائں:۔ افظ بعد ماز نی کے ایک ٹول او ریو ہہ کےقول سمط ل مفعول فاگ واو رملا 
ری کے تول سمط ان یال بھی مو کے مسن ےا 


2 © 2 ا 2 5 31 3 2 س سم زه 818 13 


اظ اوي كركف انب او 


و ووه ووه و و و ی ام 
جواپ :اگ رر فشر خودت موبلا عم ہوکر رن می شر اک مونو وه بيك وت مال و مل 
بن تا ے کما فى قوله تعالی واذ قال ربك بال و اذ مضافكى ےاورمفعول نی 
ےاورما تفعل افعل نی ان می ش کو ہوک ادوا ست ترک طرش رط وج ویش عال 
بھی ہاو تفع ل لکا مق مگ ہے۔ 

اور اگ لف بعد کے ش روم شش فا تہ ہو يلل او موجور مونو ایکا گم وی ف دالا ہوگا اور 
اس دی کیب کی والى ہوکی او ریت ول میس ابيا ھی سے بدا لقظ اما کے تام متام ہے۔ 
بال با تك انا یاس وا رو ذكركياكيا ؟طلباً للاختصار والا رتباط ک ایک 
تال ل اختقمار ےاوردوس راو کی اما کے اترما سب گی ےج ط رح اروج اء 
کوملا کا کا مد دیتاسا طط رح واو ی متطوف ومتطوف عولط سک کا مد دی ہے۔ 
)1( تن تتا ل :لفت بعد کا تال بان ویر اکر مان و لف بعد کے لع مون 
یں تن زو ںکو با كرتا سے -(۱ )عل ان فن )٣(‏ عا ےتنیف(۳کیفیت ميف _اور 
اکر شارع ہ سعد لذ سل می ان تی چ ر وں سكعلاو ديك چک زع ین أن کی 
زور مول ے پل راتس حرا ت مشلا صاح بخن امارح ره ۶ ان چاروں زو كو 
لارام نکیا اورت صر فم ادس ہیں ان سب کا ڈک ےی یں نہ 
راتا من ان کے پیا کا ط ریت ہے ےک ہاگرمصن ف کیا نكو تقرف فک رر باہو وال 
عل تيان ف کا ان ہوگااوراگرتن بامات نک كر ,ابو ضما با نیشن کاپان أو 
مل مقام ول تلا ےک هعرس پاس دوقت بب تک قوااو رن لين نے بج را کیا نو 
یخلت نف ول اور جنبال مع ف كنا بك ری فکرے وہا لكيفيت من بیان موی _ 
فان اعظم العلو ما يبال سے عل کیان بیا نف مار ہے ہی ںک یف یر 
چوک ام بای علوم سے رم رادرشان کے اط سے بڑ تھا ور لوم دی کا ارو ورف علیہ 


8 65 5 18 5 5 3 5 3 5 5 40 4 9: 5 9 5 8 


غل ون رش ضاري 


214 515552 082 :601568589550 05445 210.6 90:56 :010 0100 ۵۵ ۳۵۵۵۵ 
ای قن تس جن نا کی ےا کمک اشر فم الهلوم الدیفیہ ہونا ت لگ ر 
چک ےک ہا لک شرافت ارول چچڑوں کے اف قرت ست كرا كا موضورع بھی 
نفخ وتات کی ارف »سا لگ نیز ا سک شرت اعقیا بھی ہ ےک تام اکا م من 

کادارودارای ر بذ ارف ہوا۔ 
ات اش :٢ق‏ تا علوم ے نفک بل مكلام اشر نم شر کیمک مکا 
موضورع زات الد اورصغات الث إل او ریک مؤضورع کلام الد ے جوصفات کے ورج ٹل 


وھ 


اور ڑا حصفت ے اشرف »ول ے؟ 

جواسب (1) :علوم یرم ےم ملا م کا اختصا شکیا گیا ےکک يم کلام کے علاوم . 
دور ےتا موم ےافضل > 

چوا پ(۳): مام یں ے کی کلام افير ےا کیمک موضورع لو 
ذات ا راورصمات الل خاض ہیں ایی کے موضو کلام الث دمل زارت اڈ اور صفات الہ 
کے سا تح ساتاکام وس لکا كر ى] جا جا ےت شی رام وضو كلام اله تن لی الوم ے 
اور وضو کلام تحاص ہے جو رت وم دہ اشرف مول سے اس سے چول لی 
فیس ویر اشرف الوم سهد 

جواب(۳) :سك مكلا مک موضورع ات ربق بی عل مک مک موضورع سے 
معلومات الله من حيث انه تلبت به العقائدالدينية او رایرک موضو کلام اد 
میات ایٹراوروکیری جز و ی تل جر لیم اشر ف موا 

جواپ( ۴):۔علا کاز رون اورعبداکیمساککوئی نے جواب الکن وجبع لضي راثرف سے 
اون وج بك مكلام کم کلام اس ےک وجو شرف يمک موضورع كلام اش ے اوركلام 


2 5 5 5 35 5 53 53 5 5 5353253: 


الغلا رق كدت التضاري ١‏ ' اد 


© 5 © 5ه 5 19 © ۵ 2 5 5 5 5 85 18 5 ت9ج 3 3 ت9 12 2 3 08 3 3 15 35 397 12 52 35 828888828 3 ۵ 8ج 35 
نشکا اشا ت کم يموقو ف ے او رٹک کا ا شا تل مكلام موتو ف سل مكلام موی علیہ 
وا اوضر موق اورموقوف عل اشر ف ہوتا ےءاوین وم قراس لئ | شرف کم 
كلام میں عتا کی بش مول ےاورعقا دقر ان یسوم ہو تے يل ہز ری بھی اشرف 
ہوا ےی سن وج اشر فک الوم وت رتل الحلو مکہنا جع ہوا۔ 

منار : مت بایری )کیرک متا ر سے و تعن ے مراد میں جو يبا اعلا قال يبل کول رصب 
ہوتے سك اوران پردیا جلا دی جام تھا .مسافرول سك لع راست ہکی تلاش7 سالك واوراش 
من ے میں راجاق سے یا بقول مولا نا عیسو تست دای ے۲ و 
مركب و سا رال وفیره نے يبال منار ے مراد كيب وتا یف ارت 
ول موك ارفعهاشرفا و تالفاولنفاذ الامر علیها قران همست ماب رای 
تاليف دوس رےعلو مکی تالیف سے ادن نيز ريم رل العاوم ہے۔لسفساذ الامر عليهاك 
مطلب ب ےک تام علوم يقالن ی رکا ہی ام ناف ہوا سکول تیا علوم موقو ف ہیں اور کم 
فی موو ف علیہ ے موقو ف علیہ سے مرادادلرار بر ہیں ۔ اور ش ربج تك اسان ادلماد بت 
اوران ادلی ال عير سهد 

بل لایلیق لتعاطيه الخ: ےکیفیت معت نکایان ع1 لاير طرف وم رجور كر 
سنا سے جوقمام علوم ین داد بی وصفا ت۶ ہے كن سادق جو كروت علوم ديدي واد 1 
جات اہو الى شل تھا کی صلاحیت سے می تلم بن ےکی او رشت تد یک و لم بن ےکی . 
ال لی کی ش بھی معلوم رک او نی طور یراس طر بھی اشارہ ےک جب میس 
ا یک شی مور اہو ںو مير ادرو وص تل موجود ل _ 

اقترا :۔ یہاں قآ یپ ےکا ےک لير ستصول کے لے پر العلوم ارب 
دالاو ہے موا ضروری ےس سه ان علوم دیزی ہکا موثو ف علي ونا اليا اور ع ع لم 


ا سس 5 6 3 مل لیت 


تا كركف ليان 


عه ع هن 060 406 هوه و هه 624/6 4ه و6 6 عمو هه 000002 


فيكو اساسها و رسکیم لوف علے نایا ے بزو ضاد ے؟ 

جوا :للضي رکوس وو فعلیہکہنا پا مق روص پرضوان امن کے كوو سب سے ٠‏ 
بی تفس قرا نكو جانۓ تے بعد میں دوسرے مات کا اتا کر ے حك _ جب ل علوم دیزی ہکا 
مورف مون اوركفي رکا ال مورف ہوناہمارےذ ماشہ کے اتپا ر ے سج 

الق ين أحلم والصدعدر :یل دہ ہے جس سے فقن وافقف جوا نی مقصر ہوا کے اتک ل کا 
صلق واو تت سمت یں شل کی اہو ا 

واطالما : ے عل صن ف کایان سعط الما ل ما صد ر ییاور تمي ہے اور يهال 
واللہ ق رر ےہار تک ی ہوگاو الله طال تحدیٹ نفسى ( کغرا کمن موی ی 
یرس ا رف یاآقتا زا کے بقول طالما یش ماکان ےجو طا لکول ے روک 
رت تاس وق تن ہوا سا اوقات یں ا نس سا با نو رت انش 
تَا تصني فکروں _ 
لآ يحتوى کبفیت مص فكابيان ے صفوة شلت الصاو( صاد تجو ں ترس جا 
جل )تن تاراور نی بول 5 كن ای کناب مول چا ہے جوصحابہ وتا تین عفرا کی 
قال س ےچ مول با قال تل نیزا بل جيب کیب کت بول او جب میں ڑا لك 
وال لطا نف ہوں »کال نے بی انا کیا ہو بادوسرے سمس ہی رے جوعلا مت مین 
کی طرف ے عاصل بس ہوںء نيزا سکاب میں ارات شهورووشاز دكا اظہارہوں - 
الا ان قسصور بضاعصی: ےکی سنت تت ہو لعل یتصرف ےک 
مر ے ياس چوک یی سا ما نکم تھا جو کے اق ای اش راو رشان نے سے کرت ار هن 
7 فقد استهرف کامصراق شان جاو ل شيل نے پا رگا رب الح ز ہے يبل اسیا ر وکیا 
جس میس مر ےا ا اه او یت کی اوري عضي نم كنا ب شرو کی ۔ 


515 8 5 سس سنہ 5 :1218 3 18 3 15 5 18 


افر تفا 


جع وج 05 دوه و و وه و و و و دوجو وود و مد وود ود وحووووو 19 30190190 8 


بشم ال الرّحْمِ الرُجیٔمہ 
00 37 فاتحة الُکتاب 


ہر ری ہیں EE RE EEE‏ موی یں 


ازتسمی ام ام لمران نها مُفْسِعَة ومَبَْأه كاه 7 0 


سوہ مقر ان يول دد را نک تاو چا اش گیا کردا کال اسفادے | 


ييه او 7 على اللو زوج | 


ان مر مایا ود رس [ | 


واد من مرب سج ایس سے 


سرچ وچ یط ی چ 


ولوق نایک زد : 7 شك وا رنیم FT‏ 


أ اور عورة الوافے اورالكائي» ای وچ ے اور سورة امد اور ار اور الرعاء اور کم اسيل | 


5 


للع یملع وَالصَلوة لجرب قرا ها آواشيخابها فيه 
۱ ال کے تل ہو کی وجہ سے ان سب پر ماورسور7اصلو ا كقرابت داجب پا سب ہو ےکی ےازش | 1 
شیور اشفا لِقَوده صلی اله یه وملم می شِفَاء لكل فو | 


| اور اور سورة الشافيه اور الشفاء أب عليه السلام کے اس فرما نکی وچ لم “ور ۳ Ek‏ شفاء 55 


تست اجب ات سید یس یج تست سس یی سب 10223 222010557101 سس لاا اح تس تس دب اج سا سم سرد ی ی چ 


ا ل ج3 62080 2864-2 


اظ ا ري ند کف ال ضاري 


جح tire raa‏ یی بد بس سم را عو جیما سی سرب چم me‏ ات مکی مکی اتکی تایح ای اب ای ای وا وت بات ای ماک ڈیر می بس سم یں کات ای و لیصحت Hos O nar‏ سد مم بای ای ای سا دام دوم 


3 میت ۶۶ص ص۰ ر9" ۱ 
ال انعمت لیو ؛او رتل علا نے اس سک كبا ے اوراس ل كاز يل دو جرال ہا ہے یا ۱ 
7 0 0ھ ۱ 
صح هات بعکة چن قرب اللو واه لَما خلت الق الق 
ا طابت ہوجاے جا کیک مش ناز ل مول جس مت اش توق اد میدش تاذل مول سس وتو هر 
وَقَدُ ضح نها مکی ميه لقرله تعالی رَد یناک سَبَعَامَن الان وهو مکی 

نک بات بی ہ جک رگ ہے الال کے ا ربا نکی ے ولف د آتیناک سبعا من المثانى 


ْ 
ور اله تم نے آپ کو يخ لا عا کی )ا ےآ رگا سے 8 


خر صنق :اور ہا ںعبارت سح اسم سورة تاو را نکی دجو ہہ بیا نکرناتقصور ہے۔ 
شرع :. اس سور تکامشبور نام فا تمہ ہے اور اس کے علاد وک یکی نام ہیں كرت اسماء اس 
سورة کے بلئرم ر ہو کی وتیل کت 

ال ج چن دش حقیقات ول ۔ 

لاسو رق: ال الغو ی ن م لكق خالا ت ہیں (ا) قنور موز این ہو را سکوسورت 
ال كك ا نك سور الشیء بقية الشی وتا جاور بقية الشيء څک 2 وہوتا ے 
اورسورة کی جز رق رآ ان ہےاس لئ ا وسور کہا جانا ہے( ۲) ریصبیضہاجوف واو یکا صخ ے 
اورسو ر البلر ے ماخوڈ ےء! ال وفك و یہ یت :سو رالپ رن سط رح ش روا موق انا 
طرر سورج یط بل بات ول ہے( ۳) سور كا التق مت او رمز لک النا زل ےاور یی 


او نک ركفي التضار 2 


8 ۳ دس و‎ EO 
- جزل ین منازل الق رآ ن ہوٹی ےاس لے ا سکوسور كاجام‎ 

شر تک اصطلار میں سور عرف لون >السورة هی قطعة من القران 
مترجمة رای ملقبة بلقب مخصوص ومسماة بعلم مخصوص )اقلھا ثلث ايات 
مج کی قید سے ال نام والى تین آ پا نل مکل وظیرہ لكل با لكل کول سور 
بأل تاق لا شی ہی لهذا ال نكوسورة تي كبا جا رام الى سنت موا نا بد كرحنو 
رم یقن ےک بيب لیگ تو تی ے ووا مت اقلها ثلث ايات 
سے یت ری وخر نارح ہو اتی ںگ یکیونک کر جا يد ری ال میں مس ج خارصو ہیں 
نتنآ يات بل کال ہیں۔ ۱ 
۳ فاتحة: علا مایم سا الكولى رص ار ے با كلما مص درج بروزن ما فی دکاذ مر 
سورة کا نام م نگیا ھالائک سور مخت رح جوا يهال فا تم کا طلا ق سور 3 از رک کےطور 
بر ےن افعو ل بام الصدر- 
:تک لا امسر سکن ےکرک وو فو دوف ہیں؟ 
اب نس سجن درول فى انی وی دعا لو پر بج واول سے می شرد ںا 
ہوتا سے ادرابتراء یل سور و نی اس فانک اطلا صرف سورو اقا تہ پرہوگا۔ 

یکن علا مہ اده رح انس ےکا ےک فا احم فا كا بيخ ے برغت سے 
اس کی طرف کروی کیا متا ہت و کر ی مرول أ رك ابست جز ول 
ےکی بول اہ الول ج باک اجزاء کے مل ےکو با فا ہے۔ ۱ 
ل الکتاب : ا لک تحرف ہورےالقران المنزل على محمد المكتوب فی 
المصاحف المنقول عنه نقلا متواتر ١‏ ال جد اتاب ے ورا رآ نكر سورت ات 


و 55 5:55 :5555 333 3 9 55 3 


اغوي بت تفاي 


ج و  O‏ مت م 1 BEE‏ 2 
مراد تاو رام الق ن ش17 ل سے ورفاک کے علاو و لٹ رآ نادے۔ 

سورة فاتحة الکتاب يل اضافت : -اضاف تک کی مول ءالرمضاف 
ومضاف اليم کے ورمیا ن کو م خصو صن و کی سست ہواورمضاف الیہ عضا فكاماده جن ر پا موتو 
ال وتان ےد رمان اضافيث ہولی > _مثااخاتم فضة ای خاتم من فضة اث لكوم 
وخصو لوجر نبت موجود ہ ےکہ چا ند کی اوی اجا گی ماده ہے سو ن کی اگوی یا واندى 
کن افير اتی مادے ہیں اور فضاۃمضاف الہ م وك سما فاك ہے لے رز یی یمم 
م تیاو ارہ ت لو موم تصو صن و کی تى ہوییان مضاف مادو نر ال مل اضافت 
لای ہو خلا فضة خاتمک خير من فضة خاتمی(ای فضة لخاتمك خير من 
فضة لخاتمی) او راگ را ضا دنت م ی افص طل قکی طرف ہو ببھی اضافت لا ى موی 
شلاعلم الفقه‌(ای علم لفقه) اوراگراضافت الجزء الى اکل موت بت اضافت لای مول مشلا 
ید زیدای ید لزید - ورا كر ماف ال شا ف كيل ظ رف انر موب ضرب اليوم و 
اضائت وى مول _ 

فاده (1):- ب لبور كراضافت لای ای کہاجاتا ےکن مرف ماد مقر 
ہوتا ےمان بی با تك ول ضرور ىك ل یش ترف جارجی مقرم وبأل اضافت لا یک مج 
سك تسل ررح لام ارہ مالكل چ رکا ا بخ مدخول کے لے اخنتاضص پیر اکر ےا یں 
يبا بھی مضاف ومضراف الي بل القاس ہوتا سک مضا تقل بالضاف ال ہو سے ال 
ےا لواضافت لا ى]باجات >- 

دم( ).ری صورت شل اضاۃ از على الک کہا ہے اضافة ای الى ایکا 
وکل و جاور وج ری ئل فرق ہوا سكل رکب ہوتا اج ام سے اور برج رجز يرصاوق : 
ںآ اورک ہر رت لير صادق1 ی سيان بن الج ز یا یں موی - 


58666 5355555 2 3: 5 5 © 6 


اا2 وي فح ركف رز ضاي 


05310422663 0:2:2 0 :0:0:0 9ق 6 66.66 64 85 © 5 29596804 
خلاصه: اب اس متام بی سور فا عل اضاقت اا ى سيان نکیل الثالى شی اضافة الم 
الى اص سےسور 7 عامس او راتت خض سج اورقاتجة اب بھی اضافة لا می ےکن صن 
یل ام ام رل ی 

7و ۹ ام القران :و تسمی یشیش دادعا طق ہے اورال بی جنع کا يل جل 
امير برخطف ےج کہ هذه سورة فاتحة الکتاب جاور يل قعل يكاعطف مرا سیب 
ار چر ناس بل ان نکیل »یال جم لكا عط ف فر د( مو رفا کد اكاب )سب 
اور کلف جام ہے اكر چرمزاس بت كول جم لكا عطف جمل ب ہی مناسب ے ء یا ال 
تسمی کاخلف يبك تسسمی پٍسچ یکلام ست ہوم چاو لک اکل قا تسمی 


سورة فاتحة الکتاب وتسمی ام القر آن . 

جا لانها مفتتحة: سے فا تح الا بک وت ےء صفتتحة . صر ری ب مفول یا 
شر فک صیضہ ‏ ےکر افوا ل مز یر ہکا تال چنب ایک ی وذان يآ می ہیں ار فک 
صورت يبل فتتحة کال افتار ہوگا اورمصدررکی ورت یلمع سے افقوا ریاس 
صورت لها فكوجيز وف بل کے انی با عت انتا رح ؛اورمفحو لكل صورت می لمع ہوک 
2 5 

تل مبدء ۵ : سے وش ام القرآن ے۔ 

7 فکانها اصله و منشأه: چام رد21 ہیں اس لئ دول سلفاظ ے 
امالقرآ نك وجتيسييانك > فلله درالمصنف - ام کات مید موتا ہے پھرمبرءاول 
ست كلت ہیں ءاوراول سخ صل توس کال كت ہیں کی عل فی روکوہاہزاسمی 
ام القران ای اصل القران اورپ رام سیپ انراج ست ی بولا جا تا ے او رج ہب وتات 


۱ اضرا ري نف له اوي 


© 22 5 هه هو وخ ہر رر 606000 65 65 26 5 90 86 65 5 09009855 
دومنشاً کے درج ريل ہوتا ےل تسمى ام القران ای منشأه اور يمنعا 29 
با طور ميسو رق یش تماما ہکا موجود ہیں او رتا م رآ ن ا ی گیل ےہ ز اسورة تور 
سیب اترا ری جر چگ فت ح کال اقتا ح اور باععث افتتاح ے جوفات ااب سے 
لبذ اكاب ہے را 2 ن یرم ارتا ا ہو کیل ا رو ری یل اور 
مبراء وسبب اخرارج لمث ورمون سے اورسبب اور موتا ےڈا مال رآ ن ملق رآ ن سے سور 
امہ کے علاوه اق رآن ید مراد وكا ناس چ بم صنحت ا قد ام كام لبن کے 
ک مفتشحه مي ركام رش علا بآوبنا لت رآ ن مادلیاچاے اورمبدء 6 اصلۂ منشا ٥ی‏ 
نيرك مرج لفط رآ نکوبنا و کو ق رآ مرادلياجا ‏ اور یسب اشارا عبد 
ایم یاون نے بیانفر ائے إل - ولهذا تسمی اساسا ل ری ست کہ چول يسور 
امل اورمپرء ہے اک وج ے ا لاوا ہا کی (اوربنيادمايبتنى عليه غیره) "اما 
او لانها تشتمل : سے ام القرآ نکی تیعبت کابیان جرس طر ںام تل ی 
الولربول ہے ایر یسور تک ن تاس تقل( ) اءباری تھا ی(٢)تعبد‏ 
مره ونههيه مو ل کے ام رو ىكاكير ين ان تال اوامراورا تا بن نوی (۳ )بیان 
عدہ للمطيعين ووعيده للمش رکین وعاصین . 

#۲ اوعلی جملة معانیه الخ :نج می شض کی الود ہو جاور جب کک ول رک و 
تس بو نو شال اعا مح ےاور جب ول رک ۰:۰ : 0 قصل برح سهای‌طرن 
سورة ار احكاء رتیت ام ارک تعا لی »یت بارى تا لی یره اوداك م لیے یت از 
يرو رتل ہے اب ان احكام رن اورا یرانق گاب لول الط ربق تیم 
اوراطلا رع على مرا السعر اء ومنازل الاشقي رین بول اس سارك مل ان يعد 
تفید جزوف »اب الحمد لله رب العالمی: مين می اما رکا از اور ایک 


اس © 2 18 ا 8 ا 5 6 8 2 3 5 © ذا 


ارت ي كركف اوي 


2988866 05 8 5 55 2 05 4 6 3 0 ۵2۵۵۵292 058:6 2 50 © 8 5 22 2558 


نعبد ملاح ملي کی طرف اشا دہ سے کوک اجک مکیاد ت اکا ممل ےکولا زم ہو کے ہیں او 
وه ری مكلف وتا اور ادنا الصراط ل اطلا ںی مراب الع ناور غيسر 
المغضو ب می اطزارعك ل متا زل الاشقياءكابيان ے۔ 
اقترا :ارت مکل یں بائی کوک مشر کی ارت اخیا نے 
ا للہا نکو ملف یں مناتے تے؟_ 
واب کا رت نے یس یل تھا مرک کے اس زا لکومھازا 
عبت سركي اكه 000 
با وسلورة الکنز : ی حکیخ ایرد( نمع شد ہ) وتا جاک طرر]یسورتگی 
ےی ا ات( پش اسه یں )ينل ساي لايك تم یھی ادر 

> وسورة‌الحمد ت سل وتهليم المستله تاسبك و تمہ ایک ی٤ے۔‏ 
اشتمالها رای الفاتحه) علیها رای على الاقسام الاربعة) 

حمد پا رل ےکر با الحمد لله رب العالمین وش گیل 

ےکرک شک رک ہیں یں شنل جو مک ینام بر ولال تکرے نواہ پان سے ہو با دل سے یا 
اخضاءوجوارح سے :تو يهال كي عم پا ری تیا یک رز پان سکس داد اک یا گیا سے اوردعاء 
کی تل ىرتل اهدانا الصراط المستقيم دعاء ساو ليم امس کی ےکیوکلہ بار 
تیال نے سور ة الات بی بدو لاوا ہآ پ سےصسوا لك ےک ریق لاس 
والصلوة :ا کوسورة الصلوة کی کہا ماتا سے ولاز ملسمل بلا تف ہی دورکتوں 
ل سورت فا داجب ےکر اشوا ۲ ری در بھی ترا حاف ار ادلی کب سکب 
والگافیة والشفاء: اک یکره کف مان سک یسور مش( داوق 


وچ 2 ا 6 0ج 0ج 5ه ذا 5ت 24874 


ا افا وي كركف التضاري 


7252585 055 5 505 50 5ج 05 50 219 8 88 © 80 9905 كك 


ہو ااخروکی )كبلك شفاے غفا کل( سور فپ بطورمپالض کے ہے۔ 

کو مخ المشانی : - چودعواں نامع مثا لجز ءاول( کین کے بارے میں جار 
قول ہیس (1)عندالا امن رک رتم الشعل ہآ يات ماني ثلوديسم الله الرحمن الرحیم 
اورصراط الذین انعمت عليه مکوا نگ الک تشر ے ول(" )ناف کے بان 
O EE SS‏ امت ارج سرب 

(س)خررخ کے با سات رن وم نی یتشاد ے یس صراط الذي نأو 
اکآ تار کر تے۔ ۱ 

( )سین تی کے بال ےآ یات میں دہ نہ ال م ل ای منت 
الذین ك اتراو 
اق ڑا :جب يارو لكلف ہیں تو مصف نے سات الا نفا ق کیو ںہا؟ 

جوا :انا سے مراد تجو رك انال 2 3 اک روک تالش کر غلا یبلاج کے 
ا خلا فيل جس سے اھان كول انیس بحا( کول با نک فرشا موا ے ) 

۷ مانی : ۔ ہنی ایبملک ہے باکر یازا بضر بک > 
تچ سای مسب شی کی اورا لک گرا رکا ہےء و شی ہے س ےک پمورت نماز مغ لگ ی گر 
ی چان ےاورنزول يلك کر ےب ريسورت لیلد الع رارج بی بھی نال مول او رو بل 
کےوقت دوبارونازل موس الصا رام رضوان ام ا تول تی کے بعد توس 
کش ایی مور فا تراب واج بج رای» ریگ رند ول رخ ما نکی علا مت ے۔ 

4 ای :۔ جب سور کف لفتامشهاةيا مضی ہونا چا تھا تن كبو ل لا ۓ ؟ 


جواب:۔ یی آ یا تك صفت ہے ہک افطاسور ؟ کی لبذ لا اچ ے۔ 


© و وه و وود :© جا :ها 2 HEBE‏ 


وع 15 © 15 8 ۵ےج ٭حهوي وج در .2 ذا :ا 3 ۵ےھ .ج2 ےج و جج تا 7 ® 982 
7۲" قوله ان صح انها : -بشاوی یبارت وم ہوتا ےکا نک رر و لعي 
كله ان 2 رکیل ےآ 3 ءال کف يرول دى ہا ےک ہجو یا ت تضور تج 
رأ بوذ شت تا زل مون جس ا نکا مم مر ےو سور فان سک رزوی 
کی یہو کرد ی ورش ہیں 1 مالس کن ای 

کاب جواب دی اگیا یا سکم سورع بابلا ی يس چپ وی یئ 
یتست و حا لاک ا یک ددبار وئزولی سل سورة ہونے 0 سل بلدا كل رفح 
شا نکو بیا نکر كيل ے۔ 

اور مصنف کے ٹول وقد صح 0 

کی و نے يب كول کل تن اورا ی د بل لقوله تعالئ ولقد انیناک ان الما 
ےدک ےک یا سق - 


من الْفَاتِحَة» ومن کل سُوْرَةٍء وَعَلَيْهقرَاءُ مَك وَالْكُوْقةٍ وَفْقَهَاءُ هُمَا 


7 البرک ویس زنل امل سمل 


کت متا سا ای وہب ی یل » اور دید اف 0 کے ثراء | 


سرت ييه سے چ سی سسچرے سس ےے هأ سے نے يا عدم رد ات ات خی سے هد چ شش شش شش شر 


۱ (.سسم ال سس تین اا کاب س رکو ےر ءاوران ها 1 


سم دوچ نو جب osê N‏ سم ہے مم oro‏ بد ای 7/7 ا ay a a eê‏ اط ل بي ae‏ ا دو م و ب ل ل ا 


للا ا ھا اسم ہہت مم جار م لك لم مت مت ی ع یھ ۶ شک < مس ل ےھت 


هدوت در دج سے سس مت ات سدقم ا ت س ت م سے س سو م دو سے سیت تب ا 


ےی ہیک یل ی | 


وھ و 15 © © ود © 35 وه و 5 و وود هو 


قفاوت اضر 


يوك ٭چھ 


سس اس 


شمه ین لسن غنها فقال این لت کلام الله تغالي ۳1 


ارگ 2 


ا 


۱ تاش با باا بول رای جهن کےدرمیان هکم 


5 7 0 
أأَحَادِيْتُ كييرة ا فريز :رصق الله تقال عند " 


Tes ICT 


11:07 س کک کک کہ ا ہے ہیں ےہ کک سپ رج شر کک کک ت کک کے س کک اک 


۱ ا اعاد ےکر #لءاناحاد یت دل سے ایگ دہ سے روا تکیا ترت الو ہرم وی اشع ےک بلاشیہ 


اج جج جج جج رجش شش ش شش رہ وو رس جو ۱ 


الصَّلاة الم قال " فَاتِحَةٌ الکتاب سَبْعُ یات ء لاه بشم الله | 


0اگ باب ی مج ہہ ہہ ہش ده مم شر شی دس موی اک می منت سم مد مت ا می ات 


ا یکرم هرا فاتك الاب عق انون "“ْْ E‏ 


اس کا تس هه ی سس دس هه ت سات موت سے ساسا پت عاس سا عات هس عه عاض ل سے ع مم می جج ہج ہد ہر ہدج ہج جج 


Se SESE تحت‎ 


لخن رجنم "وقول مد سَلَمَة رجی الله عنها فرا سول الله صلی | 


ریش ی دس هه میت جج سس هه | ممه ی 


| الرحمن ل الرحیم ادن سای تارکاذم تپ | 


ن سی ی ا ا سے مم ا مت پیج و ی 


له علیه سل اه ية وَعَد بسم الله لرخمن لن الرحیم ام له رب 


سس رد رسس سڈ بج جج رہ للد ل ہی اس ا ی سرت دس یع ی دع سک کی 


اور سم اش اتن اريم مد اش رب الین كو تک آیے شر كا 


اده فاده یئ“ +. ون یں بب ہل سسجت سیب شس عفاي ينوه هع mem ma wma‏ تچ م ووه جه - 


الخالمین ای من آخلهت تلف في نها آبة براسها ام بما بعذها . 


ست ست سود س 


2 | 


اس کے ا اک ا س ی کے کے کک کک ع کک س ہے ی کے س ت ب م صصص ب ت س سے کک مم جج طاح کا یر جاب س یک سی س ا 


س 


أ اوران دوع یو لك وج سے اشتلا فکیا کیا ےک مم ا ںآ یت سے يا اپ اد کے سات لکر | 


ET‏ ال اح بیو سیت سو سو مج می کے امیا جع پان دی مم یچ شی رکم بس تق 


اواوجماع على أن ماين الي لام الله سبحانه وتاي والوقاق على | 


7 تثف :9+ ور ہے سمه ممه ماهم نے م مه شی یچچ جم 
1 
0 


۱ ۱ أ يمادق ول اما سے ابات کر جودوکول رمان سے دک الہ ے اوري كومضا حف بل 1 


GIES‏ شی وو سرت E ARE‏ ده ناس شک سس دس مس تج ا ا ای ا ا جح تا ا ات پک و 


۱ 2 ہے دميو ار 


با فی المصَاحف مع المَالَة فی تجرد ان ختى لم تب من 


أيه سمه ماماو هاه ات سے س مام عه موه ع ا ی ی ی مر هدع سس هس ےہ سس حابم ساسم مج رش کے ت مام حم شس ہب مود دب عسل 


ا کت تيب زان فل کباب عاض ر رار ی 


ریصقت :ال عبارت می لم اللہ کے جز رن ہونے دجو اك یل بیان 
فرمارے ہیں۔ 


هو © 5 8 0 5 8 818 9 8 38 ۶ك >٭عق . 


ص2۵ 


۱ مسب کرد مھ یمر را کے 
ف و ےکی f‏ ی استما لکیا اج سیفن سم الث ریالم 
ےط رک سمل »او رگ کل ان انش ے او تل ہام دہ سے اورو لہ لا حول ولاقو الا 
لتد نف ےہاک طرع یی گر رفن ال ہے۔ 
تر :اس کے جز وق رآ ن ہونے ہے کے بارے میں شور ل تن ول , 
(۱) حصن ر اشوا کوفہ ویک کےقرااورفقہا مان ميارك زب الیکا کک ہہ ےک سم اللہ 
فا کی + ہے اور ہرسور تک بھی جز عق رآ اولاز اوا 
(۴)امام ما تک »اما اوزاگی » مد بین ءبصرہ شام سك قرا وفنه ءا م کک شوانعم کے باك لكلف 
ےک ہن ان فا 26 ۶ ہے نہ سور کا رآ نكا_احنا ف قز نکابھی میسلک ے۔ - 
( )متا خر بین اهنا فک کک ہے س ےک رٹ اللہ جا ء وق رآ ن تو سے جاء تراد بل ورو 
نہیں ے۔ 

گر رفتقہا مور نامع رح ارگ يكن ا نکی طرف سے ۱ 
مم ال کے جز فا تہ ہونے کے باد می لوق موجوڈئیں ليل كان متكي كي لان کے 
یکم اللہ بن فا تاتيل ہے۔ السورة می الف لا بد 5 یکا ہے۔ی٣‏ نكانشاءي ےکہ 
امن الا لثم کے ر کیک صلوۃ می امد پل کے سره او راهن ا ٣الت‏ مق رن 
ہے کے باس می امام مھ بن ان شی انی رص الشد سے در پاف كي ا گیا تو ول نے فرمایا 
مصابین الدفتین کلام ال جو جز اق رآ ن بيد ےکاروں کے درمیان یش ےد و رآ ن 
۱ يد اورال می مم ارگ نے جس سےمعلوم بوک یرآ ن ری سب اد جب امام 
بن أن اش سے ہوا کی گی اک جب جز قر ن سجاة جیسب با نو 
نے جاب ٹیل فر ميك الى می ای کک تک پات »ودک ال بین الو تین کے 
لیے 


18 35 5 © 5 18: 66 56 555 © 5 8 


الغ ل ري نک دف اليضاري 


ھی ا کے تھووہ ھی 7 ا 
اال :امام مھ نس نشیا ل رع اط سيول سح امام نی رحه_الثدكا سلف کے ناہت ہوگا؟ 
اب :تعد ہے امام الو لوست واا مرس لی قو كو انی طرف شوب کی فی 
دصل مولى ے اام ازیو »وه ب راو رابا مرحم ال نے ا تو كوا نی طرف شوب 
بھی ںکیامعلو ہوا یی امام ااوعتیق رر ےا کاقول ے۔ 

۲ لنا احاديث کثيرة : ی صاحب توتلش فق ال مذ ہب ہیں اس سل ہب شواح 
کے مط بی دلائل کر سے ہیں - دو يليل جز وق رآ ن ہو ن کی ہیں جو ہمارے لے کی 
مور یکی نمی و آن ہد ےکی مکرتے ہیں ابد دوس ری ليل زونه 
ہو لن ےکی ہیں۔ 

7 مہ تقول ےکن یکر مھ 
ایا سورت فا کی سا تآ یس میں جن میس سے گی رکم ایا رن رجیم ے۔ 

ول (۴):۔دوسری ہس ندب ہج ےک ہب یکره نے سورت فاته . 
تلاوت فا وف اب ابسم الله الرحمن الرحيم الحمد لله رب العالمین آ یت دے 
ان سے زیت فاتمعلوم مول _ ۱ 
چوا ب دحل ():# عد یٹ او لکا جوا ب "فرات احنا فک طرف سے یہ ےک مل میس 
سس نات ZE‏ ابا تھا 
ر ا ژل‌قسمث الصلوه بینی وبين عبدى نصفين الخ جک نمی ےک جب 
بدو السحمد لله ابناج اڈ اتا فرماتے و ل حمد نی عبد ی اور چپ بثروالرحمن 
الرحیم "تا اراس میں اثنى على عبدی الخ اب رگ یبال مرش 
شرو عکیا اگ ہم رورت فا کا جز مون فلکم اش سے ش ر وکیا جا نا و دای ال كام 


و هه و چا :18 5 6 5 5193 55 348228 


۔ اي ي كركف الضاري 


2929۵6 ھ222 094:3 008 0 8 0 5 05 45 58 0ه 06 68666.29 255 وھ 


جواب و ے ليزا صلوج تن تک اد يش سے شور مونا دال ےک لم الثم کے 
نیس يهال داو یک تولا سی دوس ر ےٹول کے خلا ف ہے ادرقاعدہ ےک جب راو ىكل یا 
ول اس سابل غلا ف وق او لق لکو ار جو پیگو ل کی جا ہے۔ 

یتین بصعت ےمنقول ہے اور سکم میں ہے فر مات ہیں میں نے 
کے تیاب اوراہوکر شی تمس ییاز ی یا نی ےکی 
بھی سم اللہ جب ریس زر جز فاخ مول فو ضرور فا ت کی ط رح ا یکو رابحا جا اء حالاكله 
یں هایس ے علوم موزل ہے۔ 
جواب کل (۴):۔ میت امل على نناک جواب ےس ےک یک ہی آ یت 
فا مد لوقن اركيا اور اڈ دلو ترک کے يول نہک یت شا رکرتے ہو ئۓے۔ 

شافع عفرا تک جل میس اتلاف ہ ےک کیا الد یت ستقلہ سب پاالحمد 
له رب العالمین سا لتق كيو ل خضرت الو ہرم هرشق الق دع نکی حد ہت 
سے عم او رکا تم یت مون عابت موتا سے ال ےک اس یس تعر ےک سو الات کی 
مق ہیں جن میں سے او الکن ال رجیم سے مرش رها وال ص ييث یں 
ملآ یت ہونا خا برت يب کول وبال لم الکو اد لد کے یلار ای کہا ہے اور ری 
امارغ والى دول اد سلا می كبوكل جز تيت رآ نمی قائل ہیں۔ 
ولال ج مرآ لع :(1):-اجمارع قولى تام رات کا اتاق س ےک از الي ن كلام الله سے 
اورشن ٹیس م ایکا کی کر ہے۔ 
ول (6۳: بای حدغرات رن اکن ترآ ن نے الترا مکیل ےک رآن 
یر ام کر رن ج رن یس سے د ہو ۔جیہ لآ عن رآ ل سال ہے 
آدا سکوق رآ ن ملک کی کیا کر سآ بات کے جوا ب احاد یٹ میں لور ہیں لا الیسس 


51 © 6 5 5 65 ها 6 5 18 © 3 5 8 8 8 3 5 


اظ ا وي فرش ِلتضَاري 22 


5 © و و و © © © © موه 2ھ2ہ2ھھ- 62689262829228 5 8 و 
الله باحکم الحا کمین جوا ٹل بل یکا ظا ا ےء ان اصبح ماء کم غورا فمن 
یاتیکم بماء معین جاب ث ل الله يأتينا وهورب العالمین تکام ےجب ے 
اوامراحاد بیث ں میں اورا نی مآ ن ہیی سی سک گی اوہ ال لاق رآ ن بيد میس کک گیا 
١‏ ےو اس سے وم موتا کم اش ےہ رآ ہے۔ 

اعتراش:- جبقرآ ن رتش غر ےر رمو سور النقر-ة مدنية واياتها 
مائسان وتسع وثمانونء ,كور و یات وغی رہ کالفا لكين کے جاتے میں حالاكل يبالفاظا 

گان دش ں؟ ‏ ` 

ٹواپ(ا :ان الا کی ابت اور رآ ن ید یکا ہی ی نگ ور کے اا رن 

نا ہے جن سے صا ف اہ ہوتا هک یلاق ن کیل او سم اشامت باک رن 

یرل طخ بو ہے اس ےد رآ کا2 ءے۔ 

جواب(۲):۔۔اس کے زک کر سے يرشب موت ا ک شاب مہ الفا ی رآ نک جز ہیں » 

اجآ بات وارد ةف الہ ی ٹکو زک رک نے سے شب ہوسکنا س بکشاید ريق رآ ان کے افظ ہوں اس 

لے ان الفاظ واردة ف لی ييث بطو ر جوابا تكو كرب کیا گیا اور ان الفاظاسورة مرت وغييره کے 

کیٹ سے ش رتل ہوتا تھا ای ےکک انیا۔ 

عدم یی کم او ربراحناف کے رال :(۱) کو روس اف 

مقول یف ماتے ہیں میس نے تکرح تاه کے یناز ی اور اب وبکر وک نشی ارم کے 

ین زی کن کی ےکک لسم اش جرا شی سکام 

(۴۵):_۔مسنداص ‏ الوراؤ داور ی را لگ الع 

عن ابی هريرة ان رسول الله لقال ان سورة من القرآن ثلائون آية 


ج8 5555 5 5 5 55 555 5 8 95 


اظ وي ےرت اليضاري 


2 BE N 2214 مده‎ yT 
شفعت لرجل حتی غفرله وهی تبارک الذى بيده الملک‎ 
اک رم لوی یک بيست شا ركياجا ےو عدوا پات اكت سکاہو جا جا سے‎ 
رل( )من د اہ اورت مکی شر یف کی ردایت سے ۔خخرتعبد ایند ہ مق کے ہے‎ 
باس قال سمعنی ابی وانا فی الصلوة اقول بسم الله الرحمن الرحیم فقال‎ 
سور عی سوہ يش كان‎ 
ابغض اليه الحدث فی السلام يعنى منه وقال قد صليت مع النبى باك اس ومع ابی‎ 
بكر وعمر و مع عثمان فلم اسمع احد امنھم يقولها فلا تقلها اذا انت صلیت‎ 
۱ فقل الحمد لله رب العالمین‎ 

ال سےمعلوم مو اک ہم الد بذ نے ےش کرد ییا ہے اود بيبح ال با کی ول 
ےک سو ۃ فا تہ یس دسم اٹہ داق لال ہے اورسورة ارت پا سورق كوقياىكرين کر 
2 ماھت - 


س سس SEES EES‏ ا 


مت سم سس یت ایند ساسا سا ی ها EEE‏ سس CEES EEE‏ 


| فا YY‏ الله اقرا وو 7ا جو ےار 


وھ وت شر رت ہہس ےھ مت سس وم پت ےسک معا وتا بآ تراد مت عمط مل ےس کے سا ےت کٹ 


رو کک کے رت تج 


mm | 


لی بِوْاؤبِمْتر اتا اققا ريد عات اؤ ىدن و نفد 
ذياد ہر ہیاس بات سک قد ر مانا جاۓ لفظ ابد أ بيب عدوم ہونے اس جز کے جوم 077 بدأ 
| اور( بی معدوم مذ ال چز کے )جوا دلا کہ ےی( ای رح اقآ كومقدر مانناادٹی ہے ای 
ا 

1 بات س ےکر انا ہا ے لفظ )ابتدائ ىكوال شل زياد 


اموت ن ر ت ت عع ع عن مع نع ص عه عع مع عاد عاص عم ع جد ع سا ياب سر سر me‏ صم صم ص عم ذا مامه عد سمه سا ساسلا 


2 5157 5 5 85 49 5 (3 ف 4 


اتف وي سر : 


ا ی دس ندچ ی ی ات مه 


1 ہت سے 7 ہت 7 الله 2 


يح سمل سرت ھپ بے کت کے ی ےب سس تپ سج ات کا لات ات رک کے تی 


مَجْراَاوقوله اک نا ون ام ال عَلَى الاختضاص : قعل 


سس و ری یاس تسس نے ہس ہے و سس سکس ای ید دوچ سس هه وع داز عسل صن هس رباع مت ےر هد هب سس که دسر دص هس اد ی سے ل 


مجریها ارایاک نعبد می ال ری( مو ل کا متم )ز یاد میت ےلان ہے اور ۱ 


| احصاش 4 زیادہ ولالیت کر ولا ے اورا 3 نیم 7۳ 
oem‏ لد یی می ری ا ا بن لد اد عي ل یع mem mm‏ سسا اس سی ہے بي کک يي س ہیں ابا ن س ی کے س ت نے کے ساس کک ف س و سے کے کا کے یر حم سی هب س تس 
1 د رع #وم ۳ ۱ 


ي درد سس جج ا 


201110 


یت گت لا وقد جل آل ل ا 
0 تر اک بنا گیا ہے ( ا پا رک تالآ مت کال حیقیت ا نی مل ہو 


کو شرعا 


ہے ےت ۳ 


رد سد ہب سس حم نس سا e‏ حرج رو وو هه سس رو وی سے سم رو دیس سس رم رجہ سس سو ی تح حر وی ہی یح جم ست ت ت سس و 


۳ 
ا 
وأ 
3 
۳ 
کل ؛ 
| £ 
| 
اه 
f |‏ 
E‏ 
ا IR‏ 
۲ 
3 
تا 
با 
1 
جو 


ی ی جس 


7 یسم فلز نیقی 


n‏ تس و و ای تج وه دس وه سس وی سس 


ارام پات الك لم اش مادم م یرہ( بے کت ) چا -اوركباكيا سبك باءمصاجت 
ہے میت متبر کا 


اد سمه سس تست ماس سمح سس تست سک سم صمت صاصم حصت صم د مس تست جوم مت سح سس اعد سا سے ت سا سس سا مس می 


اك مت كا تاك نی رخن عل یز E3‏ 


سا احم و 


a 


و9 9 35 5 5 8 5 5 355 5555 32 8 15 15 


اغلا وي نت تفن نيضار 


و0202 0:29 022090900 292۵222۵ددہ وہ عو عہ مع ×ج ھ222 89 


2 > اما كيرت وَمِنْ حَق احرف ال مفردة تفع 02 
اس اشم دزا يترود ایا ےلرک اروا یروف رد کن یس سے ران | ۱ 
زگ 1 جا اه بء لل اش مول بجر 2 


2 mmm amma mme جج شیج‎ am rm mer an. 


GE GES‏ تا اس ت سے س سس سسا کے سے نھ چ ع ی سا ت سے شر ہش را 


آمدی خی ل ید 
| ایم قارف نکن کے لے لام امر ولام اضافت اور لام ابتداء ولام کیہ کے ورمياان- | 
اعرش مصنف:-و الباء مععلقة سے نے و الاسم تک عبارت کےسات حك ہیں ہر 
ای کک نر ره ہے(ا)والباء سے و کذالک يضم رک غر ے تاتا ےک هم اش جار 
۱ برو متطلقس تما بر _ 

(۳) وکذالک یضمر کل فاعل الخ ےوذالک او یک سم ی 
کل یکا مان ے۔ 

(۳)وذالک اولی اولی الخ ے وتقدیم المعمول بض مرا تکاس اوران کے 
رل کرک نک تر ديداوران کے دلا لكاروليا ے( ٣‏ )وتقدیم المعمول ههنا ست 
كيف لا کک اقر امو کر ےکی اورایک ہوا لمق ر رک جاب ہے(۵)کیف لاتهذا 
ومابعدہ تک 7ص رخاس سے جس ل رذن سے ل )١(‏ كيف لا وقد جعل الة لھا کی 
ارت می مز تت کم افق للوجووك اوی شور رین ہے(٣)‏ مسن حیسث ان 
الفعل سے وقيل الباء تک ابن عبارت پر ہونے وا لس وا لكاجواب ے(٣)وقیل‏ الباء 
بت وهذا وما بعده تک ہام کےایک دوه بیان ے(٢)وضٰذا‏ ومابعدوت 
انما کسرت کک ایی وا لکاجواب ے۔(ے)وانما کسرت الباء > والاسمتک بء 


و و و 5 5 5 55 5 3553 5 5 24ت 


۱ فا اوق كركف ار 


9 92 3 سم 53 5 ۵ 5 53 55 :3 HERBS‏ 
تاقالم ۱ 
فا هسام تخلق سات احاث میا نکیا ہیں ا یکی وج ی م وکن ےک ورت فاتك 
چیک رما تآ ات نراق ایحا کی سات ہیں اورمقو پور ےک تا أ ك بالا سمال سورت ۱ 
0 سوت فاته بل بال سم انش ارہ ارم عل ین سح اور مم ایل کا موه 
إل مال لپا مشش بند ہے اس لك ہا کے تک سات ابحامت با نکی ۔ 
تشر پیل ھک فض ب ہے کرش الل جار بج دس جز سح ہوک اچاق رور 
اس هو قرف چا تق ريف بی می ےک سافن بل ےکی کو کر اپنے 
دف لكك جني او رصق كوتو لكك ای وت با جب 1 فلك جوز امحلوم 
ہواکہ چا ریچ درا تلق ف رور ہوا ہے۔اب مها ارس تعلق بس بترا ور و انا ہیں ءاس 
1 متخ زو ہوگا یا كور اکر ان مو ا کور ق لوک ہیں اوراگراول موئ ا وظرف 
مش ركيت ہیں ۔ رال میں نج اال ہیں ۔کیوک تلق جوز وف وال موك ششٹنل »عبر 
مور رن تل با شرل افعال عامل سے ہوگا یا نا ص ٹیل ست» چا ر پچ رہ صوررت ی مقدم 
ہوگا یا مو شرفو ير موصو رتيل بم وبل امل عبارت ٹیش مصنف رحم اللہ نے اغا ر دفر مايا كم یہاں 
اکا کل اجات بھی فا ہے اور موف - ۱ 

اول الزکر( تق تل مول )اور مات الڈکر(متعلق ٹل می خرہونے ) کل بر 
مصنف رص الوسر کی عبات يبل بيا نک می گے۔ اور انی ال کر( فل نص ہونے ) یور 
ال ات يبل بیان فر مار سے ہیں (اول الک وگ دلب ےک جار ره ورمع عفن جار 
رورت ال ہوا ے اور لکرنے يل اص پل ےی کل ہونا چا ہے ورد رب 
اھر نك ہے ۔ چوک ید ل ص راح عبارت ب لكك لآ ری اس لئے ا یکا زک می نے له ی 
وا ان دا ہو کی بناير دک کیا اورا لٹ ال کی دمل وتقديم 


3 49 2 3 535 53555 55555 


الغ لن وي فرت اليغاري ۸ 


هه هه 5 © وت ده وه وه و ود وه وه 015 92 09 مهو وووووو و و 2 
المعمول سے یا نگ جا ےگ ) ۱ 
ضائبظہ:۔ بور یکلا م رب میں حا رمتا م اريت ہیں جہاں جا بو رک نی افیا ل عا لو بنایا جا ا 
ہے( جاور ای نرہ"( ۴) ذوا هال کے لۓ مال ہو( )٣‏ موصو فك صف مو( )یا 
موصو لک صل ہو لین ار متا بات شی کی ج بتر صا رف ای ابا بھی افعال خا 
کون اها سے ۔ شرا زيد من العلماء ای معدود من العلماء ء زيد على الفرس ای 
راکب على الفرس» زید فی المصر ای مقیم فى المصر بیہاں الہ چ جار ررر 
ین رین صا رفن الا فعال الما کی وجہ سے یہاں افعال خا کو کا گیا ہے نت اک طرح 
507 کک تلاوت مورتق ہے وول قرا مت بی ے ایح لو تلو سے ےک کے 
بے ہنا ب عبار کا کن وكا کروه چم جوم الل کے بآ رای عالق ريدق وج سے 
ان خا اقر ڑکا کیا ہے۔اس متام ایک عبار ل خدشرے۔ 

اشكال :آي نےفر مایا ےہ لان الذى يتلوه مقرو نوم ما کے عائل اقرء كك 
ريف ل قرامت ہے دک مقر وک مقرو تال یل ناک نز یتر ہدش 
بان 2 - 

جواب:۔اگر چت ریدو لقراءت جاور مقرو مخت الفاط ےکن ال مقر و كأث ل قرام - 
بت ساسا تجو طابست ال لے بطوراستواره اوراز کے مقر وکا ڈکرکردیا۔ 

وكذلك یضمر کل فاعل الخ :۔یدصراصۂ ارت ےا ا “كم رکه 
ایک قاعد کل با نکیا ےکہ فاط اکن الغو ی ن ام مکرنے وال ) وی لن کرتا 
هل کے لئ دومحم الکو مدآ نار پا وتا بعش ایک انا نلعا ےکا کا ش رو کرد )> 
اورم القراواى کے سك مہ اماپا ےت اء کل ىزوف 6 سه 


© 2 1 55 32 235 5 سس سد نیرت 


27 رتف ناري 


سے کت .ویو سا 
:ال رل ر ےاء کل با اشرب ویر دمراد ے ج رک كو ے عا لامک یٹس 
. فو لكي سم رکوس ایاج جا دوش تی ہوا ہے رش که كل يا اشرب دنیرہ۔ 
جواب(۱):۔ یہاں نھمرکبارت لول ے ما جعل العسمية مبدأ لمعناہ ن م 
ا۶ل ایس رحس یکی تم روما سول ی شتی ل 
سكفلا اشكال- ۱ 
جوا( ۳):- انيعبات لول >يضمر كل فاعل لفظ ما یجعل التسمية الخ 
ای اللفظ الدال عليه الخ م مرؤاعل اريك لفنالومقدركرتا ے وی يردا لكر 
ءا اوتا شال ربتا۔ 

۲ وذلک اولی الخ :۔ یہاں سے تقدیم المعمول حرا کاک اوران 
وال زک رک کےا نکی ديرك ے 

شحف رات ”مالس یف ابعدأ با ابعداء یز وف لے ہیں- 

ولا ييا بتراء:(1)ابسدأ ادال عا دک رع سيكت لطر فعال عامددٹیاکے ہنم 
کےافعال ےساد ے ہیں ایط رع ابصدا ےت لبزااىكو 
ذکرکرناجائے۔ 

(۴) اس فى مما بتکم را ام مل سے بو نکاس شلك لسم یندا کار 
ےاہالفظابعدا یتخس 

چوپ ول (۱):۔افعال عا مض رورت وقت گال جانا سے یی جس وقت ق یت صارفہ 
تاور يبال ٹر صا رذموجود ےک احر وال( و دی ےک ”تی کے بعد وكام 
کیا بار اوت دا کرم ے ابال اقر ای ہوناجاۓے۔ 


66 جا جا 5 :1ج :8 159 جا ج) © :ا 18 9 وع 


لغ وي فرش ا اوي 


اه م ا BN GA‏ 8ھ 
جواب وہل (۴):۔حدیث شريف من افتاع پلتعیہ اور ایک تیب سے ا كان 
مطل بک ےک اط ابد انقدر ماناجاے بيذاي ادا ل انیل ۱ 

لفن ابعدا مز وکا ےکی تا 2( علامہ بيضاوق رح اید نے کی قباحت تعدم ما 
یطابقه سے یا نکی ہ ےکیٹ رآ ن دم یٹ می ہی کیسالک قرب وکا عائل اب کو 
9 ناسا ےک کقوله تعالی باسم الله مجريهاء وقوله عليه 
السلام بسم الله ولجنا رات لا الله خر جنا (گمرییں 
وال ہو ےکی دعا ).وقول جبرئیل بسم الله ارقیک ل افیا ابت رأ حذ وف ٤النااستعمال‏ 
ان دل و ا ہے۔ 

()علامہ شاوی رم الد نے دوسری قباحت ما یدل عليه ست ےک ما يدل عليه 
كاعطفما يطابقهي ےای لعدم ما یدل عليدة مي ےکیٹ فعال عا ل ل 
يض افعال ام نب ككل افطل عامم ال جب افعال عام ديبل سحت ہوا بل 
ا نک داش کی وف ءا نغ قريب ضردرتگھی اور یہا ںکوگی قر يال ے۔ 
رمل تفز ایتا :ای ابعدئى بسم اللہ شارت ال ورت ٹیل مرا مي بخ كا 
اور ملاس دوا م وا رار ولا تک رتا ےلپ کم پا ری تال شل دوام وا ترا رات ؟وگا- 
اقترا :ا مسلك ب ول کار دی کرد یا اورت ںی بيا نکرد یل علامہ بضاوی دتمم 
ثراو وذلک و اج بکہنا جا ےت ال ناض اقر ء #الناواجب ےا ول یکیو ںکہا؟ 
واپ :انط ابتدا کیا ةريد لش ین ا حم ومن سے از 
بت ہوا کر راردا ہوگا ا سکی ارات ضرورہوگی اس لئ نز اقسر أكواول 
کہاداج می کہا 


ا 65 5 5 5:5 352555 5 355 


ص 


غر ري كركف الضاری 


و ا sd‏ 20 اه 
+7 وتقديم المعمول ههنا: بیعبارت کا چو اح ال می اق ءلم کر ےکی ول 
اورايل سوا ل قر رکاج اب ے 

زا لہ معتمول فق جرج انه معمول مخ ۲وت ےاورعامل من حیث انه عامل 
مقرم ہوتا عن انوا ویر مول 0 عائل وتا جلو عا لل قب #وااور ج بتک ی پک 
پیلک رنہ ہو نمی گے سکتا ے؟ نيبا ںآ پ نے عا ومو كبو كيا؟ 

جواب:۔ضا دق بجی ہے جس طر عآ پ نے فرمایا ہے یکن ال ای کتک باه اک 
مو ركرنا وکا رصن وقوه )ہے :ا یکی چا مکی ریبعت ری 
لہ دور سے کات یل سے ای کککت یی ےک نشكا نک ساسم اللات والعڑی ابتد! 
کے تج حا مو خرکر ے وای خالفت ای تیب ےر فی چا ے اک کے ہس م اللہ 
اقرء اما ے۔ ۱ 

فا ئره:_لنتاههها كر اشارهلزديا اراس متا م کے علض مات می تیم عل ی نل 
مول سا اقرء بساسم ربک يبال علام زر ىسك کے مطا ال راء تک ہیی 
وای تکر نے کے رات ما لکومقد ییا - 

بسم اللہ مجریھا اک نعبد يرال باتكل ج كيل شير ہی کر کی کک بناير الكو 
مو قراو رمو لكومقدمكيا اس > 

اعتز اف :شال ایک یکا کی دول کون ذكركيا؟ 

جواب: ایک ال رم مو لك ےاوردوسری شال مطل تقزم 17 ےایساک نعبد 
نف یم مو لک شال جاوريسم الله مجريها ومرملها ار یمیلع 
نشکیا نكا خلا فک نے کے ے يبال تقزم ماحقد ان خی کی مول ے اور زيمتمو لی 


جو و 6822-٥٤-20630236”‏ 


0۰۵۷ 


© 28 56 © 9 0 © © :7214 هون 25 و 0 4015 40 و و و 0 00099040 و و ةا 


مثا لكل ال سک يبال :مان ولد ككل مجر يها بترم اوربسم الله نے 
اور هر لول کے مز و بے براع یک نہیں ہوتا دول بی عا "نوی وتا سج معلا وهاي 
مجریها ومربها پم صد رگ ہیں يإ طرف ز ان ومكان مصد ری ما ل شيف جس ے 
متمول رن »ادرف بھی عائل شک صلاحی ول ہے ا کی تر جات 
ن کی ہے :تقاضی اوک حالش اك شی رر ے ہو ےر ایال ےک بسم الله مال ے 
ارول ارفا علس اورمجریها ترف زان ے ای ار كبوا حال کو نكم متلبسين 
باسم الله وقت اجرائها وارسانها . 

رما بل او ون لق تق مکی مالس 
#لالانه اهم وادل على الاختصاص الخ: یہاں ےنرم مو لکی پاروجو لكا 
ان ہے(ا) لاننه اهم سن چوک بارى تھالی یں اہبیت ے اس ے مق م کیا کا ظہاراہمیت 
ہا کول ضاط ےی قدمون الاهم فالاهم بجر چولگ علا تفت الى_ذعبدالقابرج رمال 
کا خیا لها س ےکک ای تکابیا ن کرد ينان کال مدنا بل و اميت بيا نکر نی ضروری 
بول ا وج اميت ہی ےک کن کے دل میس بی ایل ا م مقا صد میں سے کر ذک مود ہا س 
“واو رم ال متنا صر میں سے سے مز نكال کے ےو اس ابعیت کے اظہار کے لك تقزم 
ای 
(۲)تقدیم ما حقه التاخیر يفيد الحصر تمارک کی کب امن 
کے مقاب میں اي قرا ت ام الباری مم تر رکرنا تھا اس كمقر مکی كي ایوگ ار 
باسم اللات والعزى ابتدا_ شرا ش کی ن کا لقصو وحم ہو اک رجا تم امرف ات ور ینام 
کے رور ے اڈ ہس م الله اسر ء یں حص رقاب کرش رک نكي تالت کی دج 
ٹیس + در ابتقراء ای کے نام سے #ولامت وک ز کی کے نام ےنیس :اور اگ رمش کی کا تیر 


تدجوجوذوجوججےووو26583288و32(٭٤٭‎ 


غل وي ناري ۱ a‏ 


15 © 12 25 :4 95 90112 15 15 :4 15 9725 125 95 9:15 !688 119 وود وود 15 15 19 25288892۵5323228 
اشترا کات اکہ باسم اللات والعزى وباسم الق یبال بسم الله اقرء مت راف راد ہے ١‏ 
کہ باسم الله وحده اقر ع ئی اش رال او رالات افرارے_ 

(۳) وادخل فی التعظیم وجو :تقر )ول میس ےترک وج بسک توك تما مكلوق 
خلت بار تا یک یوقت کے ما بل بل ایک قطرہ با مقا بل رید ی وى ی مسرت 
ادا ےکی اورڑیا دہ لوا شتی SETAE‏ ناد هارا شا الہ 
تقر یم بام شک جاۓے۔ 
ها ال ت کہ ےن تدر خرن م بھی ما تلاو 

2 ولو للوچوو: یجن مم الک نيعل الحائل اون لوجور فى نفس ال ر ےی ذات 
۱ بار تھا لی جیٹس الام کے اتبا ر ےتا مكائنات سح دقدم ہیں وك سور بھی اس لف ةلوجو 
کہ دال لی ات الباری ہو مقد مک ديا جاۓ تا کر ع(تیب ذكرى )ليع ( یس 
الام گی )کے موان ہوجاۓ۔ 

وجوه تز مول لی العائل میں1 آپ نےام مففیل ے مین استعال کے ہیں اور . 

بمففی لک استما لقن طلم رن کے ی 0 
الف لام سل سات( ٣‏ )اضافت لاسا 
3 يرو :اسافضيل کے نط ر سك استعالی می کت یہ ےک انیل نی زیادل مول 
ۂة 0“ فتاه 7 0 وت موتاسهاورا تفيل س 
زیادل اضائ او ری مون ےی زیدل اض ل علیہ کے اخقبار سے بول ہے هلان رد 
سن الف لام مان ال سمال تن ر اس لے ہوتا من مخض ل ملک 
زکرم وچا سے اورز باد مق خابت ہوجاۓ۔ 


35 5335 40 15 15 35553555 5 32 


اظ وي نک اف يضري 


02:222 9 60 0ك 2ھ ڑھ 019 9.200290292 2۵62م کک هه 
اعتزاش(۱) 7 أب نے وجہ ارا وا نکر ے ہو ے انیل کا یر استعال 5 اور 
زیادثی ناب ت کی تو ا کا مطلب ہے اک قف كم بام اللہ ل امیت زیادہ مول سے اور زیادہ 
دلا ستل الاختصاص ہو ے اور ای طررع زيول ليمك اغلهارجوتا ے اورز یاد وا وف لوچو 
چاو ررکم پاری توس ہو اكد جر ياد بت وکت وغييره ا بت تيبل موی 
ینش امیت اور تست ونس اختضا بال ر تا ے حالاكلمقصودي کت ر كر 
اسم بای تھالی ماف تست واہمیت داحتا ی ونر دی بای یں ر بتا۔ 

غلا ص اعت ائض ہلگ اک اس تر نیل کے مہ چ كر الفتلى ومعنوى ووو لاد يا 
2 تاج 
چوا پ (۱ )اکر چا نیل میں زیادنی مول کک نیت اوقاتعی ا تی لکوزیاول 
دا ےی سے مج دک ریا ات ہے ال وشت الک اتال خی نظ ريقو یں ہو مشا شر ان 
رش هوهو الذى یہد ء الخلق ثم يعيده وهو اهون عليه يبال ہار تقال ے 
سا انكس كمي ادگ تال پآ سان »اب اس متام میں ریا وا لا مرادليا 
جا و »بت بد ىر الي لام ےکرک جرمطلب یی ما ےکدددہادہ پیر اکنا ده سان 
ہے او لی متیر مشكل تھا حا لالہ ری تال كي ریفس مون ۔ 
وال مرادہوگااورال متا م ںاھو نک تالف کن »الف لام اوراضادت سكسا قبل 
ہے ییحی سے ہجرد ہے الى طرع یہا ںبھی تفیل همقل سے جرد ہیں 
+ سکی بنا کن خی رکا استعال ض ردرینکیس ہے .(اس فی اي دورول )اودب چگ 
زادگ وال مر ایس بیس انميت وظیرومراد ہے لہا تا خی راسم بار یکی صورت میں مود 
لامرك ونس اما داہمیت وفيره قل بالل رہ گی - 
داب ( ")وان متا کرت مک کی لیا چا هکران فی ل کان موجود ہے 


وع 2وء٭٭ ووو 5 5 5 5 15 © 9 15 19 5195 2 


رفاو نيف ار 


00 28 و وود 00 60606 و 5 و و و و و و و رو ھی 0ھ وع 840 8 8 8 9 8 9 51:98 
اورزیادل کا ابات ہے ہب گی کول رایس 24 سیل + استنعاال تین ط بتقول ے 
و ےکی عل بجی ہو تی ےک نض ل لگ یا نکیا جا او مضل لی اگ سی قري سے معلوم ہو 
ہا ےو تی نعط ول کسی کے اتد استعا کو ضر ور ويل بسا اه اکب ر میس چوک 
ہے لوم کہ الله اکسر من كل شی عاسل لے الف لام ءاضافت ونم« ل‌ضردرت 
و کل بولا طررح ییہا ىفطل مل تر ای خنارجیہ سے معلوم ہے مس سکیا وبر سے 
اضافت ون وخ رکاذ رضروریی کل “ن تق ديم ذكر الله اهم من فعل القراء ة و اولی 
اختصاصا من التاخير وغير 907 کون نے ی زر 
نہیں (جس سل ضرال وفع بو )اور طرر يمک کر من 
موجود سارت خی کی صورت می لس ایت وا ختضاص بآ دجنا اس کہ باز ی تھا یکی 
زات ٹل ایت ذا بھی سے او وتف انميت ع تی کی جاب 21 جریم اشک 
اس كر چراہمیت عاض ىكل ےکی يان اہمیت ذال ت ہا ھی ہے ای طررح تفر وال 
صورت اول كل الا اص ےمان اگ رت مم دبك جاے ع بك ونس دلا لمت كل الا تا ستو 
ال را کول جب ایک مو انان اقر ءبسم له بالات وعز یکی متا 
جس سس دلات ال تا پا ے الى ررح اس سورت میں تقبس اہ تتم 
زیاده ےکا نتا ا نت سی سم زان رات ےگ اوراى طررح صمو رر لف مم 
اویل جود ےن ا یر دای صورت می بھی وجوش الام یکی مطابقت باقی اتی اس طرحع 
ک اعم پاک تخالل کر جل عد ؤات و جود ل قراء برمقدم موتا سيان جب ام بار تیا یکو 
ول ہونے گی وصف سا سے لیا جا ےو مغ موتا قو ا کا مو خر و کش الام 
کے موان سب لتق ووس الامری (من یٹ امول )کے موا فق ےگ رف زيم مول ارآ 
کک دہ تال کی ذا تك طرف ( من یلا ند وصف زاندعلیہ )هکت ہوئے ا 


مس سید ہب 15 15 سینت 


س0 


سی سر روا و 2 

معنو فر الى رح مول _ 

7 كيف لا وقد جعل الة لها: یہار تک پا وال حصہ هال کے كرتن حت ہیں 
اول تصہ كيف لاح الة لھگ دوم تصر من حيث سے وقیل تک وم صہ وقيل ے 
وانما کسرت تك بارش فم لون للوجووا ور طور ره منکن کارا 
مق مك ن ےکی صورت میں او ن لل جودکیوں نوجل لفظ با ءلفظ ندال سجاورباءاستعانت 
کیج بول ہے اور باءا تیا تیآ لہ وق ہے اوراً ل پیش ذئ یآ لہ سے متقدم موتا ے 
جس سے کل ےم اعم بای تال کناب مول بسن تفز یم وجو پا ری تھا لی فس الم ری و 
ھی برک اعم پاری تھالی آل راء ت ہے ود ہہ ھٹآ کہ باوكا 
استحاخ ك کاب 0 

اکت زاس :ام ہار تھا یکا لے ہدیا 3 اک کو لصو بالات وتا ے اور 
مود ,الا تاو زی آل وتا لبذ اة ب ا ىقو لسع استغفا رگ کہ اسم بارى تال (العيا 
الم ) مود سب 


۲ من حیث: یبارت کے با یی ےکا ورا حص ہے ال داحتا اورک جواب سے 
وابپ:۔آ لہ یس دو تيل ہیں ایک غ رتقصودہونے وای دوسرکی موقو ف علیہ ہونے وا ی ء 
يبال لفظ ]ل سے یت خاش مراد س جك پا ری تھی تام افعال کے لئے موتو ق عل کا دري 
كنا ی شر لت ینف ل کا اتبا ریس ج بت کی ایم بار یکا کر نکیا چا سے اور 
اک موتو فعا ی وای حي ت سروك نات لله نے مد یش ثریف کل اسر ذی بال (ای 
ذى شان ) لم يبدء ببسم الله فهو ابتر ( مقطو ع الذنب ای ناقص )يل ذكرفرا) > 
جلو قیل الباء للمصاحبة : اضر هال ٹیل با کے دوم ر ےی کا بیان کہ 


عه وهو هد i‏ 


قفا نت تناو 


SPSS EGOS 
بض ترات سن کم ابل کی با ءامص حب ت یل بای ےکن جس ط رع با بعصا حب کا ا ضا ہوتا‎ 
ےک جو جل ستول کے ے نابت ے وی میرے مرول نابت ای طرح‎ 
هالک ے شلا اشر یت الفرس بسرجه مجنی جس ط رت فیس کے لئ اشترا والا ال‎ 
بت ہے بدخول با سل اشتراء می شریک ومصاحب ہے ره پر سيط رود کے‎ 
افعال عا مرش ےم لیسا کے ان مولرعال گا اقرء کر ےای اقرء متلبسابسم الله‎ 

اک ال ماع می افعال زار ذکرکیاجاتا ےن قاصی بيشاوق نے 
لفط متب رکا کیو لپا يز افعال ءامدل كال ے؟ 

جاب :بها وتان پا رم البساافعال عامل ےی تل س ىك را رض 

تی صا حب .زد یک مهار سک مات مک هد 

فا ره وقیل الباء للمصاحبة ستل سے وم ہوا ےک قا کی بای رح اش کے 
ریک باء کے استھا ےکوی تر سیم میس ایک ای و ہے مرا حبت لاتق 
لكل س کیو می استواخ کی صورت می تیا مافعا کا دارو دارا م پا رک تھا پرہوتاے۔ 
نض ترات سكا کر نصا حبت ایا جاورا یک واد وجو« يول - 

(۱) با ءاستوا تک نال جائے تو ا کاب رخو لآ لمكا اور مابعروالى چزز یآ لاوقا ثوان سب 
گآ لاور ق یآ لس تخا وتا ےج 9 ۶۰ ان اننا سكل صورت میں 
مار ری‌شت یت یل وکر سورت فا سكماك وگ اور یآ دس اک میں بن کے 
گا۔ لا پام مصاحبت نی بل چا سے کج تیت با د كوك مصاجب اورمصاخب يل 
زان واش راک ف اکم وتا ے۔ ۱ 

(1)۴ل سل می زا پناس یی 0 


5 5 5 535 53: 6 35 5 32 23 55 5 593 


زا نارق فک را يضار 


ہہ REDE‏ کوچ ےھ 
زا یتس حل موتا ے( شا اشتریت الفرس بسرجه مس د ۱ 
تس شترا کے سات ے ادرا كات سبھی ےک شام کے کیج از امس بالسمررج بھی 
ہے )اب اگ با اواستھام تک باکر مرول رتل کر لی پا ےا ن ومطلب بو 
ےلت اج تلاس تراد كات تام بک یں ےک سے زعيت فا باق 
بال رت اور رات شو افع كمسل لكوز يق عليز ابا ماج تکاہنانا يبتك ملم . 
یاس بجر اللہ جا وت بال ر ہے۔ 

(۳) ہا كومصاحب تک ينانا عد ينث بکرم مل اموافن ‏ كوكل عد بیٹ شیف يل سے 
بسم الله الذى لا يضر مع اسمه شىء فى الارض ولا فى السماء اور يرم ی 
كاثول مع اسمه راح تكرد پاس ےک جا هتکس - 

(۴) ہا اواستی ر کا لی مک کے اس کے مدخو كوا لہ يناه سے اکر جر جواب سای کے 
ت تآ ل موق ف علیہ هل ہے او رقص ووی کے لا سكول فایس نان بہرحال 
ایک اتپا سق فص پر تھا یکا کاب ہے اوج سط بای تھا نيص فى الوا 
سے منز ہیں ای ررح فو مشت ےکی زهاو رال دی دج سک نلا كرام نے تضرع کی 
ےک لفظ علامتۃ یں اکر چا ماخ سے کان نو متا کی بنا ء ب با رئیا تھا لی باك اطلاق 
درسب اذا باستحا کال متا ناس ماج لبق درست سب - 

- وہذا و ما بعده :وهذا و ما بعده سح انما کسر تکل پار تك شا حص ہے ال‎ ٢ 
> یسیک سوا کا #واب‎ 

سوال :بای ی شہورسوال ہے اس ںکواوراس جب اورسوالو ںک کاب ”اس تھا رتھ ےکا میں 
ایک بره ےک للحا ےک ق رآ ن مي دكلام اللہ سے حالاكلمال ل پاری تال خد مار ہے 
بلكل الحمد لله رب الطلمین ءایاک نعبد وایاک نستعین »اهدنا الصراط 


و سس بب 15 5 15 دع غزٰے و ی 


زا2 وي كركف لَضاري 


سما مع ل OSG‏ 4 

المستقیم بارعا لکیام نم 

جوا :یکلام بر تالک ی سین بر تال وس بر بت يوق ہیں 
ال دج ےا پیارے بندو لکوم دس دس ہی ںکہ جب یل هس ول جز گی 
رورت کیل ےا ان الفاظ سے بزو نياذ كسا روست بس عر ک یکرو ا امک یی 
سے سور 7 ال لیم امس کہا جا جا سب سکی وج می میں مفص لاگ ريل ہے۔ ا نکی مثال 
سے ہے ہی اک ایک پیم جال کیک تب ماک بيرق طرف سے میرےفلال ددست 
کی طرف راکسوا وكاب صاح براسم سے اور ای بان سے ادا فا کرت گے 

تحية منى الیک يا حبيبى یبال صحیاۃ من اكد فا > لاتا ےکی و یکا تپ ار 
کرد ہا سيان سوب ال میں بي طرف کی ہوگا مذ ايلام بارى تال جتان ال مل 
تيه للحباد سك باری تھا ىك م ےکیے تر اص لكي اا سه 

ذا ره وذ سعلامہ ناوک رص یعہارت وكيف يحمد على نعمه 550 لله رب 

العالمین طرف اشاردے ص/2 ول كك ہا ے؟ اورال ٹل ایاک 
نعبذ و اباك نستعين شل اشارہ ےک دخو لٹ ایح تک سبب عبادت ای ےءویسال : 
من فضله یل اھدنا الصراط المستقيم ےآ خی یط را فاخاردے 

#لوانما كسرت الباءار: 5 ال ار تسا ال حص سے ۔ ال کے پچ رین حك ول - 

()وانها كسرت ےلا ختصاصهائك لاي لوال ے(۲)لاختصاصھا كما 
کسرت تک ا سوا لک باب ب( )كما کت سے والاسوكك جوا بک تور 
رکظیر ‏ جوا بکیتویاورعال ے۔ ۱ 

فا دون مصنف رح الہ نے حرف باء کے تلق سات بیان کے ہیں الک وجہ یی ہو 


8593533 5552:9555 9 


ارف رق ف اشر يضار 


.: BE E SLC 
تی جکسورت فارگ کہا تآ یا یں اس کی سات بیان کے اور تقو‎ 
شور ےک یتما ق رآ ن بالا ھال سور ترش بند ہے او ریچ سور تم بالا ال سم انشا ری‎ 
٠ ارم ٹس بن اور ہکم الذدكا موص بالا ما ترف باء یش بند ہے اس للع باء کے تق سات‎ 
“مھ مان سكف باءکی مہتنضیلت ےالکھف والرقيم فی تفسير بسم الله‎ 
ار حسمن الر حم نا كناب مل ترف پا اورا فکامناظ رہم رق م ال دی کاب سے‎ 
۱ من شاء فلیطالع‎ 
سوائی:۔ وانسما کسرت سےعلامہ ہاوگ رح ال ایک سوال کرک رر ہے ہیں جس سے‎ 
یک انا ضروری ہے۔‎ 

تروف دوم کے ہیں (۱) تروف مهال جو کیب الفا کیلع موضورع ہوں ان 
ی مک اورت ہو لاض ر ب مس ض بر »ب !)تروف سا بوک یل یتنس 
لے موضورع ہوں بجت الضادءالراءءالباء مروف مب الى كتين کہا جا جا لوف موا یکو کہا 
le‏ ے سكتريف ے لفظ وضع لمعنى مفرداور وضع لمعن یک تر روف 
ول جا تا سب چوک اعرا ب د یناک ےک صفت ےا ہز تروف ان محر ہیں ہو کے 
اورتروف معا الائ لكا درجم رسكت ہیں اور ارک کے لئے ال بنا لی الکو ن سے 
کب بناء بی دوام وا را وتا اوردوا م ار رقف کا تھا ضا کرت ہے اورضفت سکون بس نی 
سوک کو ن کل عدم ال کک تکوج کیک دای وا راری‌هضت > 

تز ا تست عدم از لها لکرس ٹیل ماک اہ رنہ ہواورسکو کی 
بھی عدم رتكا ابهذ اعدم یں شریک ہو ع بس متا سب تک يك صل مالس دون 
برو ف دوم کے ہیں دوا تن روف رکب مول تا مسد» منت خلاو غرہ 
با الیک بی 7رف ہوگا شاو ب رواب ججوتروف مركب ہوں و ون جن یی او ن ہو حلت ہیں 


تزور 9:99 85 515 82228889628 


اغا وي بت نف التضاري 


OO EE TTT‏ و 
یکن حروف مغر وو میں بنرك الکو نہیں روكق گیگ بسااوقات ا کوایتراء بل وک کرت زج 
سے اب اگرابتقداء س کون ڑھی تو ضیا رک لا ز مآ لكل بسک تحال ےہا 
الکو تون مرک تد پیا پڑ ےکی جوسکوان کےمنا سب ہواورتفیف ہواور یھر کات طلست 
خی ف 7کت ےب اا کوت يدق جا هک »یی وج ےکا نویس میں رع دجر دوفو لكو 
تقزيرى بد ابا یی یفن بڑھاجا جاے بی خت کے 

اعترائں:۔ جب مہ بات پپری بو قوذ اب خلاصاختزا ای ہے سب ہک هکم الد یس با مکی وف 
ما رد یش سے ہے اود گنه ابا بسكو نال ون ےکی وجہ سے دا 
رک تيوس د ىك مرکم تکس ہک کیوں افقياركياكيا ے؟ 

جواب:۔ لاخصصاصچاالخ سے جاب دیاس ےکآ پک ساب تقر بت ضوا ا کلم ے 
ناس ال ينه یش و ےکم ےک و فکو بيش ب كل ارپ اجات ےکن جب کسی 
مرف يمل و بیک وقت پائی جا نبل فو اال وت الک لی اکس پڑت ہیں »ای م سے 
تاعرو کم الہساکن اذا حرک حرک بالكسر ود تسب ہیں( )و فام 
ار يو الا وت شرف تی ر ےا پان بھی نہ ہے (۴ لوم بر موك پیش رای دے 
اس خو ولول اورا راب ند 

تارف ا موک کے ب کا ؟ 

چ واپ :وف اوقا ت ا ی بن جا ست میں لاان جب رو لگن موتو اک نی 
ادارا ہے یت جلس من عن يسار الخليفة يبال عن ا ہوک رصع انب کے »با 
ف عل یش اوقت کل لك 1 تا ہے علی يعلو کے باب ے۔ 

رمال ان ووصفتول کے بيك وفت وجود کے وقت مناس بکسرہ سے شک رن و 


#58 وع توت وه موہ 


الغا وي كرفي التضاري 


بب بلاق 60:0 هو وه وه مهو و مع مهو موه 0 200 و۵ 58 32901764 
رف بای ان ووصفتول موصو ف تیا اک یش 7ف اي رپا ےا م پل سی 00 
۱ کل موتا ای طط رع ہبیش لا زم الج ر ےک خواہ زان وی موا لکوت ن موت بھی 
تل جك سد ہتاے كفى بالل میس اکر چ لفط ادل فائل ےج سک تفاضا ر تین ہے 
تل یکر کے می چھوڑاء ایر بحسبک درهم ال تدای باز امد واظل ےک گل 
کرجی ديا ست لهذ ااال با وو ٹف یی ريسم ی دی ۔ 
ادو لخر شہ:۔ لاختصاصھا سلزوم الحرفية یں با چٹ واف ل ہیس بل 
یں ین رو مت فیۃ وجراو بام کے ساتھ خا ہیں یکن با فط ان یکسا تیش ال بل پا 
يبل او رك ىتصوصيات یں جیا كاف كشمنروب ے اخقص بواو | ل بلق باق بر 
وال سک وا مندوب کے ساتھ عل ہے نہ كم مندوب وا کے سساتھ خا سکول 
۱ سروب یی وغل موق ےکر چا ا کی دوس ری نوج یھی 1 سک اختص بواو ای 
امتیز بواو . 
وا و بر وومتزن میں سے ای بھی فقوو ہو جالعل ار ی بڑھا جانا سے 
مش روم رف شر ہواگر جلروم | موی نو بن کی ام جات ےگا شلا کا فش بجر 
كيش یا تواەزاندہئیکیوںنہو(لیسس کمشله شیء ینا 31 لاروم ارف یں 
مل اوقات اس میں بھی تل ہوتا ے تب زید کالاس دک ایک كيب زيد مثل 
الاسد کل اش (ا ضاف لی سد پل 
اط سی 9 ۱ 
ای ط رع کروم ارف اين اوم الج رنہ ہوت ب بھی نی کی ار بیس کے ملا واو 

معط بیز وم احرف ون كرا م پت کے تی میں بھی فلا ہوتے لادم یں 
کول اوت عطف “توف علیروالا اع راب د ےے ہیں جرک رفع ونص کی بون سلب انكو 


:55:53:5 رت 


اضرا اوي مكرك یاون 


5 5-2 © 22 و 02 2109 6 815 552 046 وه 22:2 16 10 0 5 و وه )ھ6 و و 5 
یاک 
ذا تدم :وهنا ست ین الکو ن ور( سكو ني "نا عدم رت ہے او ركسو میں 
بھی عدم ایا جا تا سكيوت کسرہ افعال اراس صرف ب لكل پا اتلد امشارکت فا 
الع مکی وجہ سے کول کے نوس ےکی بناء يرقا مقا مسر ووی بای ات ے۔ 
(۳) قرا ءحطراتكا اتات سک کون اوركسرء تارب ڈگ تحر ۳ رح ) ل لهذا 
کون سکم مکی ہنا ہا ۓےگا ءا سکوعلا می گنه اپنے حاشی شی ]اما سے 
یزاوم ج یی کا کی تظاضا ‏ ےکیفی لی السرم گیل دوضرف چار اپ رخو لکوجردیا 
جآ مرف چا رعش ہوگا او ایکا و + وکاب اس ا رکا تقاضا کر ےو کی کرو رڈ ھا 
جا تک ناف ان الاش واو ہوجاۓ اک وج ست رف هار یی کسر بڑھاگیا۔ 
2۳ یہا ںکک جواب ک ےن می نین اخ نتم و یں داب توبات کک نے ہیں۔ 
اقتال :1# پکا يكبن ل جہاں "روف ( اروم غیت ازوم ج ید ) أي مول دا نی کی 
اکس ربڑھاچاتا سے فلط سب کیک دا اوتا یہ پیش تفر سنت بل » نیز یبش دس ہیں 
مایا راگیس - 
قاب (1) :سر ذاده نے ا کا ہے جاب ديا کہ واو ورتم صل میں نت مكيل نیس 
إل اسل اکم کے 2 با تی سب کرام نا مر دوفو ب وغل موق ہے یم الشان 
72 يريم الشان سب دال موف رة اق ےاورنجزباء شرو عل اقس وكوف و لورد ولول 
رع سکن اورواك ونان مكيل جا كل حیثیت رك ہیں دی وج ےکا فقا لفط انل ہر 
رفظ مول سج نيزا يمير وفيس ہق اوراس سے پیل أن كول ہوک یروف بون 
اد مات دا لك بل »ات تكارداث ہ کہ تال داي او ۱ 
مز فضا فک نے ول ورو انل یں ال قسم اللہ لے یں کے سیت 


سس و وووووو 3530 


لرل ري پت لئے ارت 5 


وع ۵2926۵9 64 25 59626 © 5 6555 05 0 00 9500 50 00 10 وو 56 5گ و و 
دک ہے جب یرل د یت وان ما ارت اد ان 
مواق انك لا ی 
جواب (۴):۔ علا ميحد اكيم اون رتم نله جاب دیا ےک وا اورجاء ٹل وولوں 
شط ل موجو کی ہیں اع دوفوں یل صفق 2 اور برد وأو لصفت 2 کے سا متصف ہیں 
ا نکی ذات تلو کال :لہاان ٹس ذات سل لاظ ے اوم 2 تین ی 
کی عا یھی ؟ انی ے نیت قل وتا ہیف وت کی رکیل بھی آ نی ہے جب ذات کے لا 
سےان اروم جر بت دول ئل اون کے موان ا نکی کی ارح یڑ سا جا ےگا۔ 
ل كما كسرت لام الامر :سای هک رات و ےا تور انظر جواب ے۔ 
تتحیل ب ےک لا مکی چا یں ہیں (۱)جار:(٢)‏ امري(۳) جاكيري (۳) 
ابراه رل جاروك دوس ہیں (۱) دا ایکا فی غلام زید الم 
غلام لزید قا )راف لم اضر تج لک لکما لکم۔لام جارہکولاماضافت ےکی 
تی رکیا جانا كلها مور برمضافمضاف الیل لامالا مانا جعت غلام زيد ای 
غسلام لزید» بمنوان دكراضافضتكامثن سيفيد تکرنااور چہال لام جاره مدو با لكو نصيس 
ول ےجس ع نبت پا ال مرل م ابقد اتی او کیب ایک ہیام ہیں ان كول 
فرش ی کہ بضادی علض او می ففط لام ابتدايكا گنچ یہاں لام 
بترا اود کید ہے دوفو لكا وك لهذا ی سافرق ایک کلام ابر ائيس دا ل گی 
۳۷ء “راد ےشلاان زیسدا لقسائماورع کید یہ ہے داق ل لی الا فیا ل مراد ہے کے والله- 


لاضربن زیدا۔ 
سو رف سا تھے یں ذات لام 
اک ی وس تج ینک ٹلا لام اراس اود کید یج رکیل ده 


525 


تفت رت 


وتا را فقاو 


ہت ت میں موم بيت 0[ ا المفردة 
ان تفتح )کے تت لا مکی عی ا ردام سے این ایت ای داش ل الاسا اور لام جاره 
رت طبر یں فر یکر نے کے لے لام باکت رح باق رکھا الم چاه على اسر 
ایا کی ط رع لام کید یرگ افعال پر داش ہوتا اورا یکی داش لکلا فال ہوتا ہے 
ان می فر قکرنے کے ل٤‏ لام امي كن عل اکس رپڈھامگیا نک فرق ہو ے۔ 

الاصل: :ابا یه اكيري و هارو دقل اضر ا کون تا نو نا و عل | یا ما ان من مان 
لت مر اود مرول سر پا يت فرققکرنے کے سے اتی لے سے اس 
عبارت می تی یحظیر جوا با ليا ےکیونلہ ان دلوق على اکس رح فرق کے لے ما کی 
نوی عل انس یں بڑھا گیا ای وج سس تاق بضادی رحاش ے للفصل بينهماكها 
بل بال اکر لام باتوی صفت ج بیت کیسا تو کیا ہا ے تو ال وت نكوي على اکر 
بذ هنا افونا ہوگاادرلام اریز م دیتا اورقا نون ےک جزم فى الافعا کار الا بای لئے 
إل لام رویسر این با یکوقانون کے مواف کل ڑکیا ہے۔ 

ارا :قر ق ل رات تھا کس كول دلردي؟ 

ای چوپ :ارک سكديا جاح قو ری ی اعتراض ہوسکن اک اس طررع كبو لکیس 
كيو سکیا الى جز مك ا ار ض ورک نادی تھا 

س اب :لام ابت اتید عا کل خلا ف جار اورامري كريد وول 
ار كرتل لام ارہ ےکی ج بھی ج ف الاسماء کے مشا ہہ ہے فذ ہے ارہ مو تو ال 
تا ضا سك مط لق اٹ ےم كو جرد ير یکی کن تام ییاد کید یال قا نون سكملا بل 
نکی ا پڑھاکیااہے۔ 


2 5953235935335359: ١ 


:فا ری فرفر اهاري 


892020-22 9229229029ھ59ھ2228 جع 2262ی ۵ی ۵ 0609 B8‏ 8 
اعترائں:۔ دام جا رود عل اضر بحل قاری ایا اک ۳ 
Ey‏ جو وج يبل مولع چا تے موی ازوم 7 فیت وج ی وی ا کی ق ے 
پں اگرلام چاه دک مظير اودلا م ردنت سه ياست ہا کی دہ تین یی اکر 
پڑھنا اذ دون اس بت يناكم سركي ں کد کیا ؟ اوراگرا نین یی کسر 
بڑھنا ہے داغلعل اضر کافرن بھی لام اب را“ سی سعضرورى تھا اموق 2 ردان جوم 
ہے اور یکی ار بے وال ہوتا ےا یکی ولراك وتو كيب ق على کس رکیااور چار هل 
دور سے ومد خ لی اضر الا بڑھا؟ 
چوا پ :سای لام ارہ جس چوک تین مشر وٹین ا کی ذا کول زم یس قا نون کے 
موافق ایک ار ی بڑھاگیاباقی افر تک ولا ده ےک لک كافرق لا مارا 
ہے اورعنوان سے موجودتھا جن سکی وج ے تبر ىلت کے فر قکی رورت یل 
تخلاف لام هالک اھظبر اور لا مار ہے کےکہا نک فرب برک تک رت بسک تھا 
اال لك اسك كت تبر لک سان ل اکر مرها 

اس باتک نت بی هك لك لک ما( ن جاروداخ لی اضر )والالام 
ییحی رورت وال ہوا ہےاورا رای بيش يرع وفرع بر ال ہوتا »ما رو 
فصل پر دخ لل ہو اور ارام رورت بر واف لكل ہوتا و فرق موكيا خلاف اره 
فلمل شرع کیک مایا را ایاضر رول می می فقس 
کلام چار وكا رخو لی یر ورل ے اودا يتدام کا قول مرف عل ے )کو وق ام 
پرداٹل ہوسکتا ہا ورای اسم پرا بترا یی واشل ہوسا ےا لس کی بڑھا جانا > 
اور زی پڑھاجاتا ای طر لاض رب نکی ہوسکتا جاور عضر ب نکی ت يبال فرق 
ندب کت سے ہوتا تھا اس لے ان دوك قو کت تپ بل یکر ین یعلی سر بڑھا اور 


جح و 141 5 :17 دوجو و 5 55 99 


لفن خاو فك گنے الزغارن 


یی ل 0262504 aE‏ 
ارہ داق لی ام كو قافنا بق پر ها کیوکلہ و إل تبد لى ركست کے بی بھی جو لام 
ابذاك فرق ہو ے۔ 


فی قال ایام سارت تک کل بوكب 


یہ رو یں کی ہے کش یں سے مک دیہش ات ات عه سس ا اہ رہ رد ہہ رر صخا ص یں 


عند ند اضحاینا ا الِْصْرِييْنَ ريين من الآسْمَاءٍ ام خذفث سا 0 


يت 


سد تد سد سیب ت د ل٤‏ وریت ورا الى الل ا ال و 


١‏ ا e‏ ره E e‏ أ 


yT 0 


کش رر رہ شش شش ہر رہ رہ و vee ror‏ اه تس ror‏ یم میک ی ak vo‏ اس سکس مه سس سس لد اد سس دس سیم 


| ا کے اتی ہمز د وکل ماس و كا ل کر بک عادت هباج رل قرف کے ارقف ةيل | 


نت مت سس ا س ہی تھے 
و الاش 


السا ِ .وَيَشْهَدُ أ له تضریفه 4 على اسماء رای ا وسمیت 


Bal E سود سای اس سج مو‎ REESE EET 123117 AE 


وتجنء سمي هذى له 


۱ لوزن پراورآ سم ی کل هدی لفت ۳7 رن 


سس سم وس مو گے سمل ندمت جع سے مت ہد سی ات تد سس 


وال لو اتک شم نبا زکا٭ائرک الله به ارگ 


فا تراما وش وی هه ۱ 


3 3 5 5 55 5 05 5 5 5 5 5535 53 5 5 


قفاوت فك ركفي ايضار 


+5 6 6 83 53 3 3 28 92 83 93 0 ۵ 58 HHHH 


ی زین رن 2۳ 


هس بت زی مع سد مت سس مس حر رر سا کے تس ممصم س سے جس رد سے تب سح صصح صم صم میحر و سے سے سکس سوت سس ذس سے جج 


3 هروس ا ا ا 2 تچ 7 ہو_اورا بت 
7 7 سے لے 


أاور ام سے مراد اکر لف ام ہو تو ام کی کا رب کک امم مركب 6 هدارا 


سے لام سے ام زلافضار ہت 


ہر رد شر جح سس رش و دزی ب 


ET و‎ 


2 تر بون 1 ےج جح 


ا ج 


2 رود کی ار پاش ماش ره ت ران بس ارک اسم 0 


ت و تسا 78 


رر 5-56 56 94 34 555 59 38 


لفق لواو وک نے ا ۱ 


35583 35:5 53535333 3335335 ھا اتا 3 ل 5 ۶ 2 SEHER‏ 


ل اق و ا 


لها "ٰ۰ سم 


سے 5 7 0-07 0 ۱ 
| آیند, اریة به الصَّفَةٌ سس 


ا س تست ی یت دص سب ید ها سا هس وت سوه اه شر شر 


ااي ف یی وت 


ا شش بش 


ری وت پر شش شش شر 
وله 


0 


ام مر سی سس جع سی دع سے ہد یرت رد رس شش ع 


ع ار هي اس 


7 - كزلت اه عرصا عله ۰ 


| جاک رم اخ < قافون سے بوبه لت ت استعال ‏ 2 س٤‏ اور با دیا گیا با ءکو ای الف سے سس | 


اغ راصف :و الاسم عندالبصرین واللہ اصله اله الخ ت تا بیضاوی 
رجراش نے حا رال بیان کے ہیں ایل بول ہے(ا و الاسم عندالبصرین > 
تقر ما بای سور بعد فالاسم ان ارید کک اک سل (۲)فالاسم ان اریدعلف ربا 


333533 33 33555:5555: 


۱ :ا2ا وى نفع ركفي اوي 


E o E ہے‎ E 
سطور بعرو انما قال بسم الھک دوسرا مہ( ۳)وان‌ما قال بسم اللہ ے تر لور‎ 
عبادت ولم یکت بتک سرا سيل( ۳ )برو لم یکتب ے٠ و الله اصله اله تک جوت ستل ے‎ 
سل اول والاسم عندالبصرین ےفالاسم ان ارید کک ع پار ت میں بص لول اور‎ ۲ 
کوفیوں کے درمیان اخطلا فكابيان ہے راس عبارت ك1 کے ا جا اء ہیں ہ رای عرض‎ 
انگ ہے فصل درز ل_ب()والاسم عسدالبصرين > ويشهد له کی‎ 
كبارت یف حر صل اعلا ل لیر ین كود ( ")و یشھد له ےوالقلب بعید‎ 
تدك عبارت میں اسل اعلا ی عندالبصر ین کے لئ ولا ل كابيان >( ”)وال قلسب‎ 
بعیدغیر مطرد کی عبارت شس رین ب ایی اراش کے دوجواب بل( ۳)واشتفاقه‎ 
تومن السمة عدد الكو فييك ال اقا عند ابعر می کا زر ے(۵)ومن‎ 
)٦(ےہ السمة عند الكو فيين وى عبات می تسل تت عند لكؤي نک کر‎ 
واصله وسم ےورد بان الهمزة کک صل اعلا عر لكؤي كاذ ( 2 )و رد بان‎ 
الهمزة سے ومن لغائ  کی نکی تد یوکا بین ے(۸)ومن لغاته ےفالاسم ان ارہ ید‎ 
تک اخ ت امكابيان کے‎ 
فده سفرق ٹن ال اعلا لى وال اتا تی ہے ےک اعلا لی میں مع لغوق للع ت رکرتے‎ 
علا ری وك وق فو نوی وی رکا مان ہوتا ے اوراص انت می شض م ہاور‎ 
لیا نکیاجاجاے۔‎ 
(۱)والاسم عندالبصرین: ب يبلا جزء ہےاس می اسل اعلا ی كت اليص عي نكا ذكر‎ 
تاکن قرا تفر ہا کے ہی کہ اکا سل سم و تھا ا لآوابول نے ان اعا ءل ست‎ 
شا رکا ےا نکی ود مقطو اللذنب ]کا جا تاک ید » دم ہورتول کے‎ 
میا بن ال میس یدیق یرگراک جن اید ی آ لی اور بیقانون مانن ےک فلگ‎ 


ا 5 5 553555 353 3 35 9909 85 8 9 


رای وت ا تارق 1 
وک دع 3غ 9ج 115 2ل جج 1 جج 0 9ل تل 2 جا ا 


قعل سكديآ ےت کال می ےک اکل ٹل دمو 0 
۱ ام )تاا یکی" تح موافن تالو ن دماءآ ل ے کضبی جمعه ضباء اور کاخیال جک 
ضل ل دمو( 2 ا )قا وتعاىى جع دمساء فلاف تاش گی ۔ رال کےآ ری 
تر فکوعذ فك سكيني امنيا كي كيو ريسسد» دم يذ ھاگیا۔ اط رفظ اد بھی ال میں 
سمو ت٦‏ زک فوع فک سي فکیلے می نك کرک راک راک کرو کیا وتو 
چ ر کر وء ج بت برسکون مول فو بت رام سلو ن چوک محال تھا ال لے ابت راء ٹیش زو 
و كولاياككيا جوا مکی ضرور بات کے پود اکر نکی رکھا کیا ہے اسیا وجہ ے۶ بے ارہ 
در کلام ماد ک ےترک ہون ےکی وج ےگ جا جا هو ضرورت يورق ٥وا‏ ۔ 


رون عند لع رين اس مک سل سمو هاور سم یگ ہے ال کے ددا بآ تے ہیں 
سلما يسمو سموا ابر سمی یسمی سميا > على يعاو علوا اور على 
يعلى» نض رکےوقت سمو( اسان )اوردوسرے باب کےوقت سمی ال یا ہوگا جر 
ل ام جن رمو سم یکس ران »وکا ےا ی طرش مو مشمی لضم این ہو . 
سکن ے اوران اوج یہ كما یک اسماءبروزن افعال آل اد رضابط ے ےلک. 
»دزن افعال ہواس کے مط رددوط رع آ تے ہیں فعل کے ون پگ کے اقفال واحدہ 
فل اور فعل کے دزن کی جب اجزاء مفرده جڑ اس لے امم کال شم وى ہے اور 
یم وگلا 

۱ (٢)ویشھد‏ له : ھال سے اسل اعلا كر أيصر ب ٹین عسل دا ان ے۔ 
رمل( ):- اسيك ع اسماءآ »کول ضرات کے بقول وم مواق ترح اوسا مآ فی 
جا ہے شی حا کلت او سام یں معلوم ہوا اسل میں سموتها- 


ا HERT ERE‏ :7ب 1ج 5 82 2 ظا ط585 


اٹاف ری كركف ایض اوي 


و می موس کس وھ له سر کھ 0 ما 3 وو 
2017 ) :اسوك امع مسامى آ ل فی راو حرا كا کل ی ہوا تووسم‌ّال 
وا تا ام واسويا و اسم مول عالکگ ای ط رل کک اسامى مق سے 
ول (۳): ںا دض نی ہے داكا صل وسم مو وتر وسيم آل 
مالک ابي س معلوم ہو اک اکل می ہے سمو مص لول تيل التصغير والجمع 
یردان الشیء الى اصله وا لے قاعدہ کے موان ر یں - 

وليل( ).نل رن می تآ سا ید ہوت اف مث ٦‏ نی پا ےگ مالک 
اط رر »ای ددع بد فیکی اص٥‏ کیادار مار ہاش پگ تا اس لے يان 
کی مال دی۔ 

دس ۵ ):۔ ا مکیلخت می بروزن فُعَلْ دی پائی جا جرا لش هدیا 
ليل صر کے مات هذى ہواای رمعم یکی ناف تال داوق مدنا توس بون 
جا مق 
اترا :م کا ےک لفت يناو موتك صل مل وجوردہو؟ 

واب :علا شاوی رح الد نے ایک شاعم شع رکو زک رک کے ایکا جقواب دیا س کہ ہے 
لت ایک شا کے عم ریس موجورے 
الماک سُمًی مُبَارَكاً ائ رک اللہ یار کا 
ی ا تدای نے ترا نام پا رک( تم )کاس جل اٹہ تھالی نے اس نامكو پٹ فر ایا جب ترق . 
اتاو ینرغ یادا نارای 
ایدار كا مفعو اق ے؟ زی الف اشبا 6 هال سے یی فآ ہیزوف 

ے ای کا یثار ک اورمفعول علق سے يلت ف ليوف ہونار ہتا ے کے مر رت بزید 


رر ووو رر 10 :12 210 5 :9 149 :9 95 


اغوي يكرك ٍاليضاري 


9 ممه هع 8ه 362 9664 6 و و5‎ DES 
يصوت صوتا صوت حمار ای كصوت حمار‎ 

(۳)والقلب بعید غير مطرد : :بيس ل بالف سجال عل بن پان 
گی طرف یات ال کے دوجواب ہیں۔ 

اعت زاش :_قلب مکی كلامعرب میں شال ذا ہے ابا آ پ نے جواپے اتد لالات کے 
ورپ اوز ان پٹ کے ہیں بای میس ال اوی ےوز ن ہی لقلب کا ىكذ کے بعداى 
طر ح صل ہیں چناخچہ اسماء درل اوسام تاا یں امسامی درل اواسم یا 
اوسیسسم تهاءا رع دوس ےاوزان شی بھی قلب ہکا ی ىك جاو ريرق اعد فوفر ہکا 
انرا موس ےکی وچ ےانہوں نے تصوص كل اخیاری- 

چواب(۱):-ال قلب بعید یقاب رال کا ار کاب رورس شد یرہ کے وق کیا جا تا ے 
اور یہاں میس مکی ضرورت رت نیس لہ اقلب ما کول ربو را شل وقيال ے۔ 

. ٹواپ(۲):۔غیر مطرد رای غير مشتمل بجميع الاوزان )قاب کال اگر 
ول کی باب کے ایک ؟ دم وزن نل مول ہے دک اوزان نل اگ رج اوزان میں 
تلب مکانی ہو جا قو رال ماده پر ولال تكرذ وا اکوئی وز نکیل رگا نزتم نے 
اوزان اورک شال دی ےاورقاثون >العصغير والجمع يردان الشىء الى 
اصسامے اران لت تب مكالى کاقو ل کر دی ہا ےا قانون مقطع ہو جا اجک یبالگ 
طرف یں او میس ل 

(0 )و اشتسقاقه: یہاں ےا لاشتنا ن عندالبھر کی کا زک ے۔ بع لول کے بال کا 
شن مرصررسمو ہے ا کا ن ہے بلندہونا۔ وج مزا سبت وا کی ناسین کی 
كيك رفست و بائ رک شر کا ذ ریہ شعاراورعلامت با دیا یش ببہ تی تر اشياء ایی 


27ےس یی کان .رن 
ول ہی کہا ن کا الک سکول تام کل ہوتا ا تنل وفورع می دا کر دبا چا اهب یز 
اصطلا رح ما3 سک ما ےکی احم اي اشوین درف سے بان ہوتا ے اس لئے ا سکواسم 
کج ون ۱ 

اال:-ام مک کے شها راو رعلاست با بامک کی عت وین مشتق من السمة 
تبات مرن نے ا ںکوکیوں زگ رگي ؟ 

دارب :اس جل سم و ی علا متكي بام ےک کی علامت بل کے 
زج سے شم رت اور بلنرى ما ل ہولی ے او زس اصع یھی بل ری ہے۔ 

۰ (۵ )ومن السمة عند الكوفيين :۔ یہاں ےل تین عن اللي نک زک ے۔ 
تیب کے وافی تو ال اعلای رای نکو بیا نکرنا پا ےتا کن چوک سات ی ابعر کک 
ا اتتا ن ان مد كا الہ اس متا سب ت کی ہنا یل حتت تی کن او کو يبل زک رکردیا 
چا نیف رات ہیں کہ اس مکش صر سم ہ جوکہدداصل وسم گل عة تھا 
مایق مضارر كيلك وا ضز فکر کے ا لکی کرت تلود ےدک اور شر بی وا کے 
تائم مقام ےآ ے سمة ل عسة کے ہواءال کے دوبابآ ےپ ںکسرم مصدر 
وسامة مین ہونا اسم ال ےش یکیں بل دوس اباب ضر بآ تا چاورصرر بمب 
کا ی »وتا ہے ملام لگا نا | ام ای کے لے علامت انیا ہوتاے۔ 

)۹( واصله وسم :سح صل اعلا عثر التي نک زک ےک ال مل وسم ادا وک 
کف فکیل زک کے اس ےتا مقا مہو ےآ سےا اسم ہوا۔ ۱ 
ول :ساك بع ریو ں کان جب جا قذ اس می كثرت اعلا ہے اور ہار ےملک ملق 
افلا ل اورقا اعلا لكثرت اعلال ےر موتا ے۔ چنا رهری يبك سسمسو کے دا کو 


555 15 یس ا 5149 89 5 292 91 95 85 


اغ اغاري فك دییات 7 58 ہہ 
مز فک ے یں مسرل عونا ول پر 2 تت ہیں پاتا 
یلا تکا ایا بکرتے ہیں من کے اپنے لک همطل وا ومز فك ے ہیں 
اور مهو ی لا تے ہیں ا لیات سے دواعلال جار کر نے بذ ست ہیں بت وکام 
ےر مین 
2 )ورد بان الهمزة: رن کی تر دید ےکک نگل ازتدیددوفاکرےلاظفر 0 53038 
فا ده(۱) كلام عرب می لكلدا تک فیف تن طر_لق ہیں (۱) مغ ون الا جا رق مول اور 
سای الا وال گی عب ابنأ اسل میں بن تھا 1 خر دا لوح ف کی یراوس ان مضق 
لاس )٣(‏ تمحز وفۃ الا تاز ہوں سا كت الا وال ت ہوں کے ید > دم ال #لیدی »دمو 
فد زک عر فوع فک یا گیا برا ركوس كني کیا )۳١(‏ فت سسا لي الا وال وی فد 
از دول جیےافظامرء » اسر ء ال شل مرو مرء ة تے۔حد یث ش ريف شل ہے 
كفى المرء كذبا ترا وروی گیا۔ 
ده (۳) كلام عرب مس چند لیے ہیں جف نکی خحصوصیت س کان کے خرکی رکرس + 
رل ہونے سے نيال لتك تبديل ہو ای ہے ان شاقن امسر ء بھی ہے بی رٹ کی 
ال اتی مر ےآ میگ کت رن دا ہیی مرف ای ردیل لکل 
ام ہما کسبت رهینة اور ثال تج اترک اْرأونفسہ ۔ینارہنول) کی 
کی شر فوادرالاصول یکسا بهد 

اب مرا تین کت دی رک ے ہو کے ہیں نیلرب میل موجود سے 
کا مر فکوعذ فك کے ابتراءی اس ےت مقا م ہزرہ یسل یلا یا ہا سے جیے این وراص 
نو ییالط رح بھی استھا ل مو جود ےک ابا ء٣‏ شر فكو فک کے قا مقا م ری لای 


با س مة عت اکل مل و غد اود وم هرادا رعذ فک کےا م قم 
211 و ویو جا 3 3 3 3 از 17 101 19 جي 1 


اظ ري نک رشا تهاري 


و و و و جا جا وه وود و 2:85 وه و ذا هد وود وه وو و و حووومووووو. 3 


متام کےطور برتلا ىك ہے ین سار كلام رب بل اس طررح کیت ل 
ل هذ فک ر کے اول می ی قائم مقا م لا یا ات حذوفة الا واک لک کے تک رہ وس كوقام مقام 
لا ا جاۓ كتين کے اعلال یں ام کاب کرک مکی دا کواو لكل | 7 2 كر 
اس ام متام اول شم مالیا سعلبزابيد ستل 

اشكال: ابقر ایک کی سا ال مدنا سه لكلا معرب میں ا سکیاظیرموجود ہے تیه 
وجوه کو اجوةٌ ادر وشا حاو اشاح بڑھاکیا يلا ل قاع ر کے فلاف ے۔ 

چواپ :بيبا لكل سكاو لو فك کے قائم متام زو لا گیا ان سکم کے 
اول دا در نهک سای كي كي ہے زان میں زوس یی ہے جو 
کل کا ہے بكلا عرب میں اک تیر لق ابنذ ال ر فکوحز فك کے تمزه سی لیا ہاے 
ی وج سکاف امیس جو هته تمر ع فک سكاس کے قا مقا م الف لام لا کے ہیں فقا 
زو »باق ری پک دمل و جك قاد اعلا ل بتر ےکر اعلال ےلان اس وق 
.پیلک وچ جوازك ىنكل د 

(۸)ومن لغاته سے فالاسم ان اریدتک اف ظط امم کے تاق لدا بور هكابيان سب سيم 
اغات !رین یش سے سی ای لكيس تج ني یں شت رک ہیں چنا ماس سل تلق يارج شارت 
لبور ہیں زا (شم (۳) اسم (۳) سم (") سم (۵)سمی ان بج ےش م یکاچی 
ال بھ ین ےن بی دک ہو چکا ےا یہاں کر سکیا اور امم کات ابر ی سے بیان 
شور اذا کو کرک ےکیاضرورت دش اور ےم کراس لے یا نی سک یکرت رمل 
٠‏ سے کل بڑھاجا ۓگااسی وکل ے اسم کوک پڑھاجا 62لا کو ا كا > 
بع اراس تلن عرش رک یہی کیا 


بسم اللہ الذی فی كل سورة سم (الذات نام سے لكانام سودت کے رو ٹیس ہے ) 
هجوج جو 5 © 45 0 9 5 جا 49 45 15 وود 


قوي فرافر هار 


و و ووووووو 604ھ ھ٭ وج جع جع 45 6 55 5 5 290ھ 
ماو ee‏ وبر ب )دونو لطر ره کاچ وچ ےک بے اور شم وولوں 
لخي ف ريقان كنز ديل ہیں اگ رکوعین ےمان وضع ہولدا ةلامز کر کےا لیمکت 
سا نکودی سے دیا ادا یع کت کے عذ کر سک خن سان لضم ديا جوا کے متا سب 
کردا ڈوف بولا کر ( جب لدع ون ش دا رال كد كياب کہ 
دوسریی وا حذوفم پردلال تک ے )وسم ہوا۔اوراھ رشان کے رہب سكموا أن سمو بو 
تاکز فك کےا لک مرک تیم ریخ ہوااور وک شمو بشم )بھی تتعمل ہے 
بذ ايهال بھی فت دا وکح ذ فک ناڈ اورا یکی کیت مكود یړک اور اسم اور ام "اس طررح 
کال وس تو عند لئان نوا كوضذ فکر کے ہہ لی قائم متام لا سر موم نہ 
لاه و یکوکس رود یااورکندالبصر ٹین سم وگ دا لوص فك کے ابا رکا نکیا او رجھزہ: 
وی وروا ل کيا اراس بو رن و یکوت وجاك ولال کر وا و وف بر الب 
کین کے ند دی وال میزوفۃ اول یل بو اور رن کے نز ویک ۲ غر می اب ان پا 
ات یں سے چا رلفا تفع کزان آ خیش ذکرکیاادر مسمی پر اع مین 
کے دی کی اس ك ا کو رمل کے رنگ میں نی وک رکردیا۔ بقل ستل اول سک 
اتزا شایگل ہوۓ۔ 
فالاسم ان ارید لیخ : ۔ سے دوس امن ےج اتیک كلام سے ہے۔ لفظاا م کے 
بارے می ایک مع کت ال راءاختلاف س ےک اعم خی نکی ہوتا ہے با خی ری ؟ ای بای 
راطا كوكرك کے اس می لب اف مار ہے ہیں - 
اسن 7 بنا ہے انیم رگا ؟ بض اشا عرہ کے نز دک الس شا کی بو اور تل 
کے ناو ریک امم خر یٹ .ال اختلا فک یں منظركلا معرب کےمحاورات اور امش کلام 
عربكااختلاف تب زيد کاتب يبال زيرك نك ے اوحض امش رس | ام یبر ری موا 


تفاي يرك التضاري 
یتر 


وھ 12119 :1 وج و و وی و و و و و و ووو و دو جج 8 2 ا لف 
حت كتبت زيدا يبال ز بد ےلفظ زیر راد ہے کرات ز یرہ یہاں ام خی ری ےاورراً 


ہو مدع 


یت زیدا عل دوٹوں امال ہو کح ہیں ,نو جوت ل مثا لول اورا ورات ل اختلاف تھااس لئے 
۱ اشا غ رہ او رز لہ کے ورمیان اخَلا ف موكيا 
يبال سے ای صاحب رمشاک فر مار ے ہی ںکہ نارق نذا لفق کے 

مشاب ہے ورد اختلا فک يسركل بھی اساء ہیں ان کے تین معان ہو کے ہیں (۱) 
ام سے لف مراد( )لم ےڈا تک عرادہو ۳٣(‏ )اسم سےصفت قا لخي رمرادہوگی ء 
جب ائم ع لفظ راو مولو ی تام ہم شی کی ہوگااو رگا ا سے ات مرادمولو ییا مدلن وگ ہو 
اوراگ رام سس شت مرا دمو صفا تک یمک یناج اک مکی صنت مول اع بھی دیہان :62 - 
اما :فاص یہکہ جب معا ا مکی شقوق میں سکول ين ہو جا كل فو ای مکی 
عینیت وظیریت ا کی بھی معلوم ہو جا ۓےگی البزاي اختلا ف لفتى ری نہ ہوا ءاور وش 
صاحب سمال ما تا فک س ےکی ھج ہ كما كارا تكلا رب 
یس تد نتم کے مان کے ماو مت قاس لے تن موان ٹس تما رکیا ہے :ا نکی 
اش یلزید معرب يبال افظامرادےزید صائم ل ذاتمرادےء ان بل تسعا 
وتسعین اسما يفت »اور ین امش تمارق امعا اکا کی ہیں :اس سے يبد 
بی کرد ہن الم زید كاتب و رونا ا فك وضاح تک بلس - 
۱۳۳۱ :دجبا ب اعم سے لفط مراد موو و پا لام كر یی ہوگا۔ 
دل (1) لاه یحالف من اصوات مقطعة غير قار داتس رکب 
ہے اوراصوا بھی مقطورع ہوئی ہیں فرع الا جزاء مول ہیںء الفا اتف وصوت کے بجر 
در هكياجاتا.>» والمسمی لایکون كذلك نهک مرک ب کن اصوات مقطعه ٹر 


قرفي مون اكرعينيت موق .4 .ا ھک بطر ۶ نابات بو مارا ررح 
وھ ہے تووهوو: 


أبس لبذا ریت ثابت مول 

مل (۳) لف از مضہ واخصا رکی وج سس كتنف ہو جا تا ے بل ہ ایک ز مان بھی اختلا ف ال 
کی وج سكلف ہوجاتا ہے ملا اووس پان عر لی يل ماء» فانک سآ بء اکر یی میں 
وا ےم نی ایک تیار لرتنک ہوا تا کا قاضا قفا كرام کے اختلا یک 
طر حخکی بھی لف ہو جا جا جالاگم کیا ایک هی فيرعت ثابت مول 

دی( ۳) کا عرب تسا مت ادف پا ثلا ليث اور اسد دوو ل شی رکے لئے 
اماء ہیں غیسث اور یم دوٹوں يارش کے لے اما ہیں۔ اکر امین ھی مولو رواسا سے 
تخر زی ہوتا مالک ہما ایک ہے جس سے نی رتفا یت ہولی۔ 

وکل (۳) كلام عرب می اماش رر باس جاتے ہیں عیفیت ام با کی کا تقاضا ےکہ 
٠‏ وعدت ام سے وعدت کی »ول چا سے عالاگ هک بہت ہیں ینس سے معلوم ہو اک ہاسم سے 
رت رکا ہوناے۔ ۱ 

سل (۵ )مد تیف ش سان الله دسعا وتسعین اسما ها رانک ہو 
و اء کے تروك طررح تخرد ز ات با دی تھا لاز مآ ا ےا یط ررح (معاز القد ) ذات پار 
بھی نانوے بول ٹنیس اور یہ ال سے ہمعلوم ہوا اسم بوذت اراد ولف کے نی ریا ہوتا ہے۔ 
رس 0 بوفت اراده لفظ ان ھی مع أو ا یے جاورا تكلا مرب میں مو جودمو ل 
عالاكلرا کم کے ورات مو جوڈڑیل بل ثلا لول راا کلت اسم الخبز با شربت اسم 
الما ء معلوم واک اسم اوقت اراد ولفظ غ ری ہوتا ے۔ : 

عن مال :# اكرام ےڈا رک مراد ہو اس وت ا شا نمی بر مال ماورا تكلام 
عرب میں يب أذ ريل جيك ن انق صا حب رحم اق دوک فر ہا سے ہی ںکہا یع کا استعا لكلا م 


51 25 101545 515 15 ج21 14:15 89 18:12 15 15 :1 15 35 


غر De‏ 
رب میں ورش ےت سد رر شا ۱ 
یی ک۱(2) فآ نبیر التبا رک اسم ربك ا ررح سبح اسم ربکالدہ 
منقامات یں اعم سے ذات مرا دہ وک رام شی ن کی کول پا کی تھا کیا میا نکی الى > 
کان کےا مگی۔ 
(۲) میتی ےک ایی وی کی بیو كانا مشلا نیب تا اب اگ را نے وا 
طالق یو یکوطلاقی ہو جا ۓگی »ال سے معلوم »وت س جک ناب سے ذات ی مراد ہے اورا 
یا نی تھا تذ طلاق ی ور طلاق د يئل- 
اتر لال او لكا جاب (۱) رآ ن بی رک ان دآ یات ٹن ام سے مرادالفاظا بل ذات 
یی او ری ی تقصوو کر با تال را ہیں جن ط رع میرک ذات سے ترک حاص٥‏ لکیا 
جانا سباك ررح ھر سے اکم کتک ما کچ او رتیه هیر ات زو ورن 
التب وال ہے ای رر میا اع بھی نو اورم ران اف ل سه جناي ستل سن ےک جو 
اساءم ضوح لزات الپاری إل ان کم ضرورى على نشرک نام خالق راز ش٤‏ علام وره 
نیس داجس 
چوپ( ۳) لفق ام ان دوفو ںآ ول يل زائد ے جب ےی زائدظ ذا کی کیسے مراد 
2 کے اتام ريل اور كلا رب نکیا لبیدشاعرکاشعرے ے 

الى الحول ثم اسم السلام علیکما من یبک حولاکاملا فقد اعتذر 
یشب نریم سنا وفات کے ونت اپ دوجو ںکوخاط بک کے کہا تھا 
۱ رو دونو ں ایک سا لكك چ ملام موم ووفول پر جورو مسا لپ رب سی و«معزور ے۔ 
اںںلقظ ا مزاندے۔ ۱ 
فائرم:_افطام سدزائرمو کی قحم کلف استحا ل کیا ہے زان سکہا ات ان ہم 


جع رر رر یس رٹ یش 


اغ رن داري 


وو 0ج 260 6 :ا٤دیع۶‏ 


ماوت و 
فته ات رل لکاجواب :یغار ی اترا لتا لک جاب ہے ےکہ زیضب طالقٹل 
فا نينب كان کی نیس سے برا یکو رک کي لفط نب مقر كي ا گیا سب ىہ لفظ 
ادا ذات مکی کے لے کچ ۱ 
شی ها لمك :۔ اگ راس ےم فت مراد رف کیم کر گے او را کم کے موان اسم 
کم ىك دجي سبك سفت تم موق ے(ا) مفو تج زيد عالم(7) 
اما ءم لیصفت کچ میں شا ضار ب مضروب(۳)مفت؟ تام پر - عسالم 
صف توک ال ونت مول جب ر جل عالم ۳ 24 یمامت ہونے ی 
ہے او ریلم اليصفت ےنس میں یط دوفوں نوس اند کش یں کن تنم 
پیر ہونے کے یاظ سفنت ہن يبا لصفت سے مراد يكيل دوفو لت نیس برع کی 
دی ہے جام لوان الاشعرق کہا ےلان لله تسعة وتسعین اسما یبال اس سے 
صفات مراد ہیں چنا ی ابتذا صفات باری دوک مکی ہیں (ا لی (۳) و -اول الک رک مثال 
ان اللہ لیس بجوهر ولا بعرض یال مس صفا تی بیجن تزي كيان کے لج ول 
رو صفا تق نم مکی ہیں (۱) یکشم ووصغات ج ن اتل (وجودڈنی )اور 
تن (و جو اريك ) في وقوف ده منلاوجودءحیات بار تھا لی یرو 
(۲)رواول لياط سے موقو فطل الشیر مول ال کو اضافیہ كش كت ہیں جب آبليت » إحريت» 
میت (س)آتقل ول کے فياظط سے تان ندمو ليك کن مار گی سك لاط سارح ال اضر 
بال ا نيقي زا ضاف ت كت نون شلام ذد رت »رز ویر یبال نار یش راز یکا 
شن مب ہوگاج کرو مرزوق ہو وعلی هذا لقياس- 
اب ج یہہ ضہ ہیں ہے بالاتفال تن ذات بادک میں جھ اضافرگضم میں ہے 


85553:5355: 535 5 15 5 5 2 


۱ ناو كركف البضاري 


وود دهد رر لوج ر رر ون و و و و نت و و ا ںہ 


پل تفا رز ات بارى میں اور جو<قيقي. ذات الا ضاقد #ل» ینکن ذات ل اور نرات 
ہیں اور ول اغتیا رک نافلا ف کے اعتراضات سے کے کے لئے ے۔ 

:ها امم سے مرادصفات دض ہوں دبال اس نک دكا لور چہاں اسم سے 
صفانت اضافیرمرادہوں وبال ام ييا رک ہہوگا اور ججبال ام سے مرادصفات “قيقير زات 
الا ضائد مول وپال! شت ذات ذا لود ترات ہوگا۔ 

وانما قال بسم الله ولم يقل باللّه: 1 شو 
چو اب انراز سے لا حتف یں 

اکت رای :# مم اید پا ءاستامت يامصاحب کی ہے او راستعاعت یا مصاحبت لفظا ادك 
سا موی چا گی درمياان میس لفظ اس مکاکیوں ذکرکیا؟ 

وب (1 )فط اسم کرک کے اشار ہکرد کہ ای تیا کک ,یقت نھر ام سك بوتوي 
تی ا وج سے باد تقال بارش کہ گیا ےک لا یتصور با له ولا بکنهه . 
واب (۴)( کی ) كلام عرب مس بابقصيكى لفظ اساسا ار تا ی مواق ہو 
جا ےکن لفظ اسم ہا میرف لکل موق تسم ال کیا کیرک می مرا دوب نک 
وم وکا تھا 

ار چوا بپ( ۳) اشار كردي كل بادك نھالی کے نا ف اسماء یں سے مراک کے سراد 
رک حص كياج سکماے اللہ کت تو ہم اخنتصاص با البق 

ولم یکتب الاللف: ۔ الوا جواب ک ےکن شا کر ں ر 

اقترا :ہزرہ ول درج كلام میں تل گر جاتا کی نكتابت ارم بل باق را 
با چنا بس الاسم الفسوق(پ٢۲)‏ لا چتتطابطلگزو لوط فیاگیاے 


وع وع 25 


٠‏ اغا وي كركف ايضار 


0 2-90 009:209 0۵00 ھ 2929200280222202 696965 629962 HRS‏ 
3 تیال یں پیہاں‌بسم تم زو یکو بھی مز کیا ای پات 
چواب(۱ کت استعا ل ی تزف حل تخي ف كيلك :مره مذ فكي ا كيا > ب رک ت 
استما لک مراد ےو رکز ہے استتعا ل تلف سپ روسن تھا۔ ۱ 
جواب )٣(‏ ہ كل جم زہکومز کیاکی بلا یرای مک یکئی ‏ ےک با کے مساو 
سا ایا کہ زوو کے علاصت ارچ _ 


جج 


وله اه إله“ فخذفت الْهَمْرَةوَعْوَض عنها الف واللام ولیک | 


نر رب زد دعس سس ہے 


1 
0 
۱ 
۱ 
٦ 
1 
0 
1 
1 
0 


اه ۳ 


REE E یه‎ 


أ اورلفظ الله اسك ال اله بل اتروع ف رو٣‏ کیا با اورا یچ میں انف لام لا یا ۳ 


قبل االله بالشطع إل أنه مُحْمَصٌ بالْمغودِبالْحَق_ لاله في 


ایس ال اماج سام یل کےا گر بے یک بی( لاش )حرو ران سدس ترش ہے جل اله 


E DAE E EEE‏ رس سس .سج شس سس ہش شر مس یعاس سج تحت ساسا یت سس سل 


لآل کل مَفُوُد »ثم غلب علی اعد بالق وله من له | 


انی رر سس 4 ا الْوٌعَةٌ 


اب تا اک کے حا کہ 


1 
۳۹ 
هل ۱ 
۱ 


کر رر شش سر تست مه هه هچ هی سره eme aî‏ الحو لوال اكد للد ا ا 


کے 807 8 


جج ای رید ا 
٣ 5‏ مد 2 عنس پش سے 


سم ی تس تم له متا پش مشچ جنگ مه مادم مرتحم ما وب سم و سے و 


رح و ع وو ور ور بد دس ود سرد اعد ع جن اعد سد جہ ا ا ت گم 


سے کے e‏ 


542 :2535 وے 5 5 55 :55 22 2> ھ 


لغري يكرك ايضار ے٣‏ 
BEHERE‏ 


4ج arr‏ جع جد ra a‏ نج ka rete mt‏ سی رہ لاس ای ta‏ سس یی یساس مان مھ a‏ سی دید nase‏ معاي مسو د ep zara anaes n‏ 


یه وَهُوَيُجيْرَةُ حَقِیقَة َو بزغمه أوْمِنْ آلة الفصیل إذا اولع بأمّهء 
اس(سجور)کیطرف ی را ارجا ہےاوردو الکو پنادد یا ے(اگرسعبو ر تی ہو ند اي یا(اگر“جورپطل 
مو )عبد كان کے مطا یا ال ے ال غےعیسل سے سے ہا ال کے سا کم چٹ جاسةٌ» 


سی سس سد مع بي سد سم س متم ام ا ا 


رذ الْعِبَادُ ب یعون ن بالتضرّ ع یه فی الشداند آؤمِنْ او من وله إِذَا تحير 
أ ا لئ كبتك ال کے اتقو ا تقر ےک نے سات کےا ہے ول سیا ریو لے جر | 


تخب عفله , وگان ال ولا ققّت اور همه وسیقال الْكَسْرَةٍ 
| انید انق ل ہوجاۓے_اورای صل ولاه تی بیس وا مر کے ساتھ برل یی و وکسرہ سكاس پیل ہونے کے 
عَلَيّهَا ِسِْتْقَال الضمَة في وجوه ء فَقِيْلَ اله" کاغاء وَإِشَا 
۱ جیا کو جورخل ا ل چا یس الاه کیا الاه کیاکی گان اعساء ا اور اشاح ساح کے۔اوراں قو لکوررکرتاہے 
المع على یه دزن أؤلهة ول الله ضكر لاه را 
۱ 3 کا الهة کون پآ اک او لهة کےوزن اد ركبا گیا ےک ا سک اسل لاه لم لاه يليه ليها ولاها 


1 و .مس ۶٣‏ رھ و عام روا م  '‏ مر ٣ر‏ چا ےر و رو عو مه و 
|( يحنت وازتفعلانه مات وتغالی مَخجوب عن ادرک 
| کدی ليد ہواو چپ باس ال اتال ای بندو ں ترو ں ے۲ 1 حول کے اور چ 


لابْضَارء وَمُرْتَفِع على کل شیء عم لا يلق به وَيَشْهَدُ له قول الشاعر 
| دد ںاد مرچ بت ہیں اور رازه ہیں جوان سل سعاورا کیل ش اع کال شا ہے | 
۸ 6/۶ 


ا کے هام ۱ أ و 0 720 + 

NE‏ ای نا | هدفه لاه الکب از 
کت ال ena‏ ل رر رش هو هاوگ 

اد لیات کی اس تم کی اا اتوس کہ الہ رال 

اغراف عبارت:۔والل اصله سےلقڈار حم نک ت ھی صاحب رح ارفا ال کے 

باد ےک كلياره اقواال بیان فرمارے تفيل ہے ےک والله اصلہ ے واشتقاقه تف 


35 2518139535333535: 15535599 


ناري 


و رر یل ینم رن نیہ یی ین رد یر HEHE‏ 
قفش صا حب راذن با ٹس جیا نکی ہیں »و اف ے سس 
اعلال اله اور ولذلک قيل يا الله لھ لللقطع ا کی عبارت يبل ایک ہوا لکا جاب .الا 
اله حو اشتقاقه كك من الفا اله »لاله اور اش فرق یا ن/ لقصور_يءاورو اشتقاقه 
ے الرحمن كك فاگ اسل کے بار ےش اد نام بكابياان >- 
فادو:۔ جس طرح ذات بارکی تقال EO‏ 
تیال لف الہ کی تین میں بھی مفسرمین حراس وشتین مقول ران میں چاچ شاوی 
شرف یشرع اوہ کے صن بھی لف ا کین میں تخیرنظ رآ ے ہہ ںک لفط اشک تی نكو 
قمر نے کک کے ردا ےا 07 یا وج ے دک رگا عل امك اوتا هشر 
موق شر یف باب الا سا ی( ے۹ ۴6 )بل حطرتسعیر بن تب ری اثرعشرگ صد یٹ > 
کہا کے وال ہے حضو راکرم ےکی کے باوجوداپنا نا م من ت ہل کی ت فو خضرت 
سعیدفرمات ہی لك لا يز الى میسنا الحزو نة( بیش تم شعن اوم ر )تج سط رحاس کا 
اک ہوتا ہے ای ررح یہا کی قات پا رک تھالی کے انوار لات کان سیرک 
میں ےک ا یقن مك وكقول انان جران ہیں۔ 
اتلاف اول :۔ چنا ابتداء لاش اختلاف کہ میس بای ہے یاع في ء رباد > 
تق ,رکشت اکا هت کچ کش ذکر ار راہب ہیں۔ 
رهب اول :-افظ اشم ا اتر ےج کون شی صاحب ر الث لف أ رغ رمتب سلطور ير ٠‏ 
آ عبارت شل و قیل اصله لاها با لسریا نية ست وتفخيم كل بیان نف رمادے پل - 
هب ال ی اطع ب وکر مضت سے وتان :صاح ب آخرى عبادت سے يد 
والاظهر انه وصف ےوقیل اصلہ لاھک بيانفرياد > ہیں- 


”وع و جج وج 53 53 3 82 55 19 


09 و 29:0:2 0.9.8 00 © 80919565 م 
مهب لنش :عر لي كلم جامد سج ءا لوق ی صا ف فرك دومہبوں سے يدو قبل 
علم لذاته سے والاظه رتك نياك فر مار ہے ڑں۔ 
مہب رائع :عر لى جو لع فرشتن ہےاسکوقاضی صا حب واشتقاقه ے وقيل علم لذاته 
تک بیان فر مار ہے ہیں »الل مہب رای کی میات اه زیا دہ سے کیوئ اکا تن مدر کے 
آ ما وال بل - 
لفظ ای دج ف مات ہی ںکافظ الله کاک اعطاى الله تاره ال هلوت 
استعا ل کی وج يا غلا ف قا لون قيال عط فک دی اود ا کے قاعم متام الف لاھم ولاب گیا 
روز ف شآ بل میں مم کی شاف ٤‏ الہ کی تون وش لا زم روم ہیں 
کیو رکذت استعال ہی شی خف مولي ےء مرف تا نون الک کار موان نا نون 
ہوا و از فك کے اک کہا کے تام قا م دومرف ند لابا چا ا کلام رب می انی 
كل نی نہیں گت یک تالون کے موافق ایک مر فکووزف كد سایقم ما کی 
دوسرے7 فکولایا جا » شور ےک ہقاضی بيضاوى اپ شیر للف کشا مکحلا 
از رک کے نو ش تان لین شا یراد ےکا ےک ہاش لک سل الله كبن مده سے 
بت علا رز بی سك اسل کے ۔کیونکہانہوں سک ال الہ قاس می شب ہو 
کنا ےالف لام سکف کل وکا اقا كات عم جوا 
اکر 0 قباطت , ری جازيا 1 می سکیو ليب سگرایاگیااور 
می ہج پر فا تلفق یوںگ رجا ے؟ 
جثواب: اف رل جوالف لام سار تس میں اویش ہو ےک تراه 
هش بی اورا یت ریف ہو ےکی جب اس حرف ثرا کرو كرد يا ہا ےلو چگ ال 


لی 3535 یریپ رت 


اظ اوي كركف اهاري 


و۵۵ ۵5 55353355555056 3 رس نیودت 28 1 


لیر یف ےاورد وآ ےتحریف ایک مقام می شی نیس جوا امنادی ہونے کے 
وت اس الف لام ریف سے بجر كر ديا جا جا ے اور فتن تع ويف کی نت مراد ی ہا سب» 
جب عویش کی حشیت موی تو اسونت الف لام کر ین ہوک ل 
یت ستاو کو الى رک ہو ۓے سا اللہ می ںی لگرا کی اکر میا دک ت ہو بر جوک 
تیف کے دو لو نكا اجا ع ال ہوتا اسك وال الف لا مکی ل حیشی تر فک باتی گر 
وگ وت کلام يب گراد 1 با سب وال ایک سک میقیت رکنات - 
فرق بن الا لفاغ ا :كلام رب یل اجام کے باس میں تن اصطلاحات ہیں (۱ 
اساوالا جنال :ج نکااطلاق بل ور رام رموشااتمر ھا )اعلا مص :جوابتراء ويح 
میس دی ا ایک ج کے اتی ا یط رح ا ون ری دوسری بیکش ول من ہو ہیں 
كواعلام ذا یی سكت ہیں (۳)اعلام نی نع نوس نکی ورن کے هک نین 
در کی ایی جز سے راتو کروی ہے مبالفہ کے میتی کے کی وہہ 
شزازيد شجاعز ری ببادر ے يبال بالف کے لئ ے۔ 
یسا الصعق : ۔ اک وش ق کیک کک کے ی کن بعد رتش ہوا کف کے 
اننس نے پار ی تھالی کے تل کہ اک (العيا ذ ہاش كياالش رتل کے ہیں ا چا ند كا 
ہے قذاس يل يذ ى اوردو را ہدگیا۔ 

اب فرب ےکی لها ءالاجنال کل ے یطاق على کل معبود 
سواء كان حقاً او باطلا چنا رآ نبیر دی افرأيت من اتخذ الهه هواه وقوله 
تعالٰی ا نظر الى الھک الذی ظلت عليه عاكفاً ان دو يتول اون میں الك 
اطلاق معبددان باطلم بر ہوا سهد اورلفظ رصم سے یل سے س ےک ابتقرا ہی سے يرافظ 
اص سڈ ارت باك تی ود پا کے ات ادرالا لراك جرضع انی ہم سكمخبووصادق 


مج" وف نا ی اق ٤‏ 4 ا ياه تا ٭اقاب 


اضرا لاو كركف الضاري 


نمیو کو یھو ہب رت کت 
لل کے لئ ہیا نمی کی بویت کے کا ل طود با تی یش پا سے جان کی 
وچ سے اب یکی خا ہے ود تق ساتجھ ا فر قكوعبادت سے( علا مگیم اولح 
کے بيان سمط لق )ال طررح کاس کم الا انه مختص بالمعبود بالحق ش‌لفظ الث 
كافرق ےب روالاله فى الاصل يقع على كل معبود میں الالهوا_لالفلاموحكايت 
كابنا بل گنی عد ركس بنا بل ملظ الس ہی ہے الف لا ماش رہ کے ے ہے اس افظ 
اله طرف جو مرکو رہ پالا ےت اس وت ال يارت سح الفكاف رق :دک پر ثم غلب یی راو نے 
گیا ت ھک طرف .وت الف مکی عدكاا ررك کہ نکر الالفكافرقبيا نکردیاجایگا۔ 
اقترا :.۔ اس تج کا تا بآ پ س نهک قانون کے مطاب نکیا ہے مالک اہرآ فلاف 
قن ری ے؟ ۱ ۱ 
واب :سكل برع میں ا سس شوه و بت ہرک کے ک کیا 
پا ےڈ یف مرادہوادر جب اک یی مكولونايا جا فو دوس رشت مرادموتا سے مہا بالق ای 
نعمت سے ان ٹھا گیا ہے اور بح مکی نع تک را بکتب ولپ جانا ہے چنا نچہ 
کاش + (الرابع السحذیر هو معمول بتقدير اتق )تو ال متام یس ايل اعتراش 
yt‏ + لکا جواب اک تعن کے تت دبا گیا کرام اہ رک صورت س۶ز ےک ن 
صر رک رار او رس و ور کےلوٹا نے کے ویز را طلا ی مراد ہے ءا ی طز Gd‏ 
تب یب يل ان اتحد معنا ہاور گے وان كثر معنا هکس سكسا تج اعت رای متا او 
اکا جواب عاشی میں ای تنعت ے قاد ہا نے :وس می د گیا ےکہ ان اتحد معناه 
میں ا نیا رک ورت ٹیل «سعناه ےکی م وضو ل مراد ہاور وان کش رک یر ےرا 
کے :تمده ئل رررے۔ ۱ 


22 2 215 25 سا 3 3 لسلست 


ارفا دفر زاوي OP‏ 
سم 8:18 18 :85188 :318 B8‏ 
قو له واشتقاقه : ۔ یہاں ت وقيل علم لذاته‌گگ رہب رائع ک لفط اشع ف ہویم 
تن ہے )یا فاده ہیں۔ ۱ 
زار تن من مس خر اقوا ل نل د چنا ی ا كاماد ه اتا فى موز اما ال داو یا 
اجوف یال »اجو فيل اورال واو یکا ایک اک احال عادر ال موز الغا کے یں - 
قول اول: من الہ ےوقیل من اله كك موز الفاء ہوک باب سے سے صا درن 
آے ہں(١)لَة‏ یاه إلهة لعَیَديَعبُد عبادة ( ۲) الو هة بنی يبنو بنوة (۳)الو هية 
كعبد يعبد عبودیةا ن تال ماد وت ایی ی چک اله عبد اس بابك - 
مر يريك ستل ول تال تعد استاله مث استعبد. 
وج لي :اف ال شل می الله تتو مص رین مضعول سے ےکا ب کک بقل نی 
مالوہ ای معبود ہوات با ری تھا كانم انش افد اس تسا تومتبورانپاط ہکی وجني وى 
کیا جا ے کات ا می کاس بای ام یع مود ہو ےکہاجا تا ارچ 
اٹل بی ہے بيك نکغار کمن سک لاط سے وو مود ہیں _ ق ای صاحب رم اللہ نے وجہ 
تی جرا ہونے کے بل فا 
قول ف:-قیل من اله حاو من الهت تک بیان‌فر مار ے ہی ںکڑیوزالطاء با بم !خر 
صل نموت ےقیرہوناآلہ فلان ای تحير وچوا کی ےک بصررا له مشعول 
مالوہ کے ہار تالا إل لانه محر فى معرفته ود ال كى م ایک 
ران کرت نے ترا لورت مان ليا س>- 
ثولم لمث : موز الغا ء باب وت کا کمن بصلہ السی مع ہوا ےسون سا لک رہاب 
یه یبالگ ظا ہر کہ ول بارى تخا مهالوه ول ای مسکون الب تلب ہار تھا 


اع 5 5 5 2 :533515:25 35 3 5 


لزا ل ري فف هاري 


مب 002و پہوپپووووچھچھواچسا وت 


کے کر سے بی من مو ست ہیں اوررو کو وکر پاری سے بی کون عیب موتا سے او یوران 
اط لكوتي الہ اسل ہا جا تا ےک گر جا نایم اگل ی بی یکن ان کے عابد بین ان کے کم 
سے بی ون ما کر ہیں۔ ۱ 
فا ه(۱):-فل با لق اک رخواہشات سے جوتو انس كت ہیں اورا/ للق ممح ا موتو ا کو 
ددس کات ہے اورقل بکااطلاقی دوفرل پر ہوتا قل بقلب اح ہا جا > لانه یقلب 
یا ات سس تی تحلق ہوم ہے بھی بار تا لی کے اتی تلق ہوتا ےکماذکرہ 
العلا رگم وی ماش 
فائدہ(۴):. قول خلت می بصل ال کی تید لو بل صل تب رل ہوجا تاج 
تب قال اليه ای اشار اليه قال عنه ای روى عنهء قال عليه ای تقول و کذب عليه 


لق قرع ندا فول بور سام سس 
كي موت ےک مصعیب تک وج امک يال م رکا کو بیان ییا ہاں اله“ 
ا رف ماله م وگ با وما اس اسم بار تھا یکی دج یا چو برقل کے فرش یا نک ۱ 
س ےکہ بار تی یا موی دلا ى ملا ہوتا ے با یتیاور ی نفس الام من موص کے لئ یا 
زم ال کے لياط سے شر ک کا ملا مود بطل موتا سك پاری تال کے سامش موعد ابی 
کیرات جا ن لتا اورک اپنا موک ساب 

ولا :وا لھ غیسر کےا بموز الفا يكن رن بريد ياب افعال سے 
.وکا ےک ق ی صاحب الل نے جوا سکیا سب اجاره غيره كير 
نے اسے پناددگی اک وج یہ ےک ج٘ سط ابوا بل تصوصیات بول میں شاع ذب روک 
ھا ہو نےکا جيك مز یتیل من دایتعا بك ہے ای ط ربا ب افعا ل کی 


5 5 5 اس اتی 5 5 513 5 6 ششسششت 


لغ ا وي تن الرضاوي 


211100111111111 2 
ایل‌تصوصیت صر ور كل ے لاھ ذا اسیر اطيسب منه رطبا یں تیا نے کیک 
جلاعي راورارطبكا ا > اذا صسار ذالبر دو ذار طب ا تحصوصی تک ما لص 
احسن (مزيد ن )کی ےی کے بار ےی تھا ا نےککھاے ای اذا صار ذا حسن 
دوس کی امش بھی موجود ہیں _ ای طط رح باب افعا یکا جنر وسلب کے ےک یآ نا سے شلا رآ ن 
یرٹ ب وعلی الذين يطيقونه فدية طعام مسکین ومسل ہبی كل يل طاقت 
روز ےکی ہوووضرورروزور کے !کے ظا رآ متخا لف نظ رآ رجی ےا انی تو جات فس رین 
فک ہیں۔ ۱ 

صاحب جلا ليان شیف نے ال مہ ناف مرا ےلکن علامہ زشش کی اور 
دوم ےا رن سے اسكوا چا كبا يوك ووفرماتے ہی كمال رم تبون ہرمک 
لا کر( ہے ءالہت قانون کے با تلا جه کل نا قصل سے اور کت ہو 
دبال لاٹ یکوٹیالا جانا سے تر 1 نیرٹ 5 تاالله تفتز تذ کر يوسف الخ يبال لاو 
مقرر ما نکر لا تسفتو کا اكياجانابءاورعلام زم کی نے ا لآ یت بی ياب افعال کے 
اوسا کاردا چ اور طی قو نكن سوب الطاقةكاكيا ےجس سے اطبا قآ یت ہو ۔ 
جانا ہے ین اس متام یس قال کر یہ ات أمحد شن علا سیرک رم ادن ےکی س کہ 
يبال ند یلار ہے ا ودنہ اع وسل بکا سے لصوم ايام تن کے تخ نا زل وی جو 
اترا الام یل فض تھے اوران ایام کے تلق اهاز ت كرت كوطافتت بو وگ فذربہدے 
کرروز هو اورا ی مرادکے لُ٤‏ رید كما کتب على الذین من قبلکم ےک 
بجی ایام رئیش کے روز هب نون میں فرش كءنيز ايامًا معدودات یی تی روجو ےس 
کامصداق ایام ئیٹل ہی بن حلت ہیں »روم رمضا نکی فرضیت وتخا شهر رمضان 
الذی انزل فيه القران سال ےر ضا ن شیف کے روز و لك رضت مول ءيجي 


5535528 33 3 823 8 سیئر 5 9 5 5 


اظ وي ركفي ضار r‏ 
نین دود مین یی پر سیر رر لت متتیں 
مده ساكل ا لطر فمن كان منکم مريضاً کے دود قو و كرك نے بی لک رای دتا 
تراط اش خا کین شرو رت یکاش باب افعال سے ہے اور تفز سل بكا سق ہوگا 
ال كر اہ ٹگرنا+<کا لا زی ی ہوگا جا يناه نا اور لسن ديينا کی لمم یا بتاء یں 
صاحب ال هک رها ءال مہ باب افعالیمصررالها تق مو لہ موس 
کاس ہوگا يناه دين دالا اوراز ال كيرا مف كرس وال وجي وان ےک يارى تی بھی 
110100 نشرک کے لئ مود اع ل پیر ہے 
بر الل میس ان اقا او با مز وکیا ےچ رب لکرم تی کا کے اسقعا لك و ہے 
یف لج ایز لومذ ف کرو كياب یکرم تکرم اکرم ای ےہ رہف 
کے مز فکیاکیاے۔ 
اب ال صا حب رت ال چو تھے اود پا نچ لقا لکواکٹھاؤکرکیا هی دون 

کی تع ایک یی ج کوت ای صاحب نے ایک :یبارت شی تماما با نکیا کہ لان 
العابد يفزع عليه انی چو تقو لکیہ تسیا نکی ے و يجيرد يل پا نچ یں قو لک ہے 
کیا ہیف رق بسک پیل بیس ہصدریت یرف اوردوسرے می صر کن اسم فلج 
ٹول ساولی: وا ماب من ناور وخا کہ اله الفصیل اذاولع بامه مس 
وت او یک بر انی ما لك طرف دودح کے لئ تی كرتا ہے ام ےو ال یی لیت 
مالوہ ای مولع کہ با ری تقال نی سك اس ”لوقت بارکی تا یکی طرف تفر 
کے سا تق کر ہیں يتل هید اور نفس الام رہوتا ہے مین کے لے ہو ہاگن می اور 
مود ٹل میں شش زگ لل کےا سے ہوتا ہے۔ 

قو ل سائع :۔ شال دای بسكم وله یولہ ولاھاءوا مضا درع بل لز و فكي ں کو رف 
عل تز وف الفاءثی المضارر کے فتظاددی ياب ل وسع يسع اوروطئ یطی نوا له صل 


3 5 228918 9 8: 523 15 2 19 15 5 2 519 12518 518 


ازل ري تر ضایر 2 


ان اه قاو ف ہو ےک فعلك رو E e‏ 
عات هونا ہے(واج ب کیل ہوتا چنا چ آل یرٹ من وعاء اخيه انات وا کےساتھ ے) 
شا وجوه کو اجوه اور وشاح وعاء كو اشاح اعاء بڑھاجا تا سے دی یت وا وت و 
بھی تمهت کردیاجا تاے خلاقل هوا لله احد یس احد اسل میس وحد تھاتڈاں 
قا ون کے مطابق الله ال میس ولا وتھاء وا وکوالف یتب لک کے اه گیا کا ن خی رکا 
وج ةيكز ريل ہے برای دووی ہیں وجو وس استعالکی ےاوروشا حم لت 
کی شال جوکہ ال کے اك لهال انی صاحب نے ارتو لل کر > ویرددے - 
ا اک لان ےالتصغیر والجمع یردان الشی الى اصله اظ ے 
وچ ای مادہ سے موف هوالع اولهةمول پا کے ی مالا اديع الهة سس 
تلم اک موز الغاء ے قال واو ىال - 
قولم :اج ف بان شرب لاه يليه ليها ولاهااذااحتجب و ارتفع دو 
«صررول کےا ظط ےد قآ إل ` 

می واي سك اری تھا یبھی توبن الابصار ل اورم رتفح البق ہیں٠‏ 
ال وق بھی مص درن اسم فائل ہوگا ی مرتفح وب بم اله شش لا تر بعد از مضا 
زار له ذه اكها- شب شع سے ني كك ی صاحب رص الد نے اقا ی کی 
شاع کیش رل لاه نوماي كياج ۱ 
مكَجِلْفةِيِنْ ابی راح يُمُهذمالاف ةالكبار 
ترجہ :ابور ہا كمسلل جوا کاڈ اجو وی نتا ے۔ ورف خول میں حساسفة کی 
ماس حلقة سال صورت تشک + ابو با کی قامم مولي ہے ا سك با ٹیس ا اڑا 
ووی نز ےت ۱ 


2355 15 35 5 5 ہد یر یس رت 


رفاو نت لف نهاري ۳ 


0ج6 5 35 3 :3 6 تہج 8 : 

تاس يل لامحمرا و تس رم روز ا 0 
کے إحداسكوالاه پڑھاگیا۔ 

ابش )ول ل يسمعول جل بر يشهده چاو یش ر ہا چا ےک ا ئا س 
مود ھی عاض ہوتا ہے اور انی وج بی ےکی ش کین اپ لس ماه تقو ںکوبغلوں 
لاک کت تاس 2يشهدهاد 

مہب اول میں تن من کے اعقبارےآ خر افوا ل م ہے 
عم لذا مسر ضو 0 ترصف اضف به وهلا ۱ 
اورک گیا كوه ا ذا و لک ہے اس ل كرو وموصوف بای تا ے اوراس کے تفت یل 
لائی پان ار اس 2 کہ ؛س كيك ای ام کا مون ضروری 2 ہی کی 


ا ملاس تسا اما 


رر و و 


7020 


ال مت 


۳2 ۹ 


ِا الرَّحْمٰنْ 08-7 
االائر من کیک راهطا یی کدف ال کے ابا ےلان | 


ايت علیہ بی لا تعمل فی ثرو وصَارَ له كول بل رن ۱ 


gag ge ا‎ e eme ال ا اا‎ 


| جب فلبد کیااک برا تيت كال ذا مت باک تال کے نی میں تالک موچاو ی رع باشل شريا | . 


اا ےط وچ چو ہے ہہ 


2 سح رظ 


الع اجر مَجرَاهُ في جرا لضاف عليه اماع اضف ہو 
اصع الهش نع ما :ایا روصا ف جا یکن ذ درا کے امت كه نے چان ے | 


و الا اق ما شر 8 


اغا وي فص ركف لصاوي 


9 265 595 5 یل 5 :219 5995 55 55 5958 5055 05 یی سل یل 


ا ل ی ر 


ج ت 


سُبْحَانَة وَنَعَالی وَهُوَ الله فی السموات مغنی صَحیْحاً » لان مَعْنى 
۱ ما کا وهو اللہ فی السموت کا نبرک ندندو سكا اورا ےک ےکک اشنا کی | | 


70ص0139 
| دو ون مھ سے ايب » کا دس کے ساتھ لق اور ترکیب میں شرک بو 


رو خاصل بَیْن وَبَیْن لاصوّل الْمَذْكوْرَةٍ » رقیل اضله لام | 
1 ادرب فط اش اور ا کے د کے ذکرارده رده اصولوں ٹس ای سے او رگا گیا س کہ ای کی ال لاات دأ 
بالسريّانية فرب بخذف الالف الاخيرة » وَإذخال اللام عَلَيْهِ 
۱ سا بان یآ غ ری ال فکوعذ فک نے اور ما رداق کے کے سات اکر ای أ ۱ 
انرا مصنف:_وقيل علم نذاته المخصوصة سے مب ال اول كابيان - 
۱ ےک لفظ ری ہوکرعلم امس تنل اور ای کے مو كيلك ای صاحب نے تین 
لای کل کے إل -لانه يوصف ولایوصف به شس دمل اول سج ولانه حولانه لو 
كان وصفا تك دور دمل ولانه لو كان وصفا سے نےکر و الاظه رک تی ری وم لکا 
بیان س>ءو الاظهر سے نےکر قیسل اصله لاها تك نیب الث وقول عاشركابيان ےجس 


اغلا وي كركف الضاري 


پ بب ١‏ ا ود هه :10 15 95 9 تل رت و و و وو و وو وووو رر یں 
کیل یی کہ لکن هل م بکایان اور لکنه سے لان ذاته من حیث ۳ 
ان دلا لكا ددس جولفظ اش کم ہونے يرد گے اور لان ذاته ےقیسل اصله لاها 
تک نہب غالث (انه و صف )ب د لال ملا شکابیان ے( و لپ زا ارت اج زار ۳۵) 
اورآ قرعم دوس شراک با نکردہ بث زک رکر میں گے جس میں ور 
حرا تك طرف ے نہب مان یک 2 نی اور ہہب ول کے ردکاکرہوگا۔ 
تر :۔رقیل علم لذاته یبال سکم ہب غائ اورا کے دلا ل رور کے ہیں- 
رہب انی تول باجح : ےک فظ الع لی ہوک یلم جا در سے شف کل ال لوت کے 
لے تقاضی صا ہب نے تین دا بی سك ہیں۔ 
رأبل0) لانه يوصف ولايوصف به می يبل دمل شلك ے لرضارطروقا لون ے لہ 
كرك كلل میں اتقاق مانا ما سح فو اس میں متو مصدرى و ونیا ضرو کیا ہا ا عمشلا 
ضارب اور مضروب ل لآاضرب “لن مص درا حاط ے اور تن اناجا كلو 
ال يلتق یک لا كياجانا لار جل و فسرس» اب لفن للم ذال ہک راس شس 
پلک یت مصدری رشن كال تال - 
خلا ص ربل لاک اگ شقن ہوم ناس میں عنم وص کال د مرج اد رجش سک س ن نی 
ودک نی صفت اضرو ربأ ہےء ھا لئ کا مرب می ب لاصفت کےطور ی تھی استوال 
یں ہوا یل بیش وصوف ی ر جتاہے جب یش موصوف بی ر پتا ےو یی لس وی زر 
مواچ بت وق موا فؤستق اک ہواء جب اس لتق ا یکا اشبات ماو بل یرس خو وکو ر 
بت موك لوكلا كبن ترا مک 5 û‏ ےک شزا ت البادىنقالى لہاج ہی ا کے 
ےن می ابت بوک تومت علس خو رکو وهات ہو جائیگا۔ 


تفا نت یضار ےا 


25 2 و و و و و و و و و و 89 و و وود 1709 35 :87 وت 119 0 3 2 53 2 5 3 5 523 5 3 3 3 
ولیل :)٣(‏ .جس ذات کے جن بھی اسم فا ول اذك اطق اورا نک استتعاال مب برس 
ہے جب ان سے يكيل ایک ایا مود و جوفقظ زات پ ولال تک ے مي لتق ون یکلا 
کل ہو جنانيكى کے لئے جوادہ شیا :ما فال ویر کانبات تب م موک جب باق 
رل ہو جج ذات پر ولا یکر سے ورت اك كول لغ بھی الا ت مو جوز ات پر ھی دلا ل کر ےآ 
0 مفاحرهض یس چر کی میں گے؟ باری تالمع اص کی ذا ت كيلك اا 2 صف حي 
ہیں اورلفظ »نو رال اقا جك لفت شک اطلا تش یز ات پا ری تال سے اوراس افظ 
ال کےسواکوئی ابيا لفظ مو جور نج كوفتنط دا کل الزات ما نکر اس صفاج یکو اک 
صضت تر ازدیا جا »رفظ لگ دا کل ذات ال بارکی تہ باستو ہا ری تھا یک ذات > 
دلا تك نے اورسفات کے ابا ت كيل کول بھی نر ےگا جرک باعل سے رای لف الد 
کیم زا خی ریا کن ونی کے ما كرموصوف کے درج ری رکا جا ےگا تاک ردو سر ےا کے 
فا حصفت وا تع بوک مج باق نی موق ومن ایک ات ہوا اوراشبات 
مت ای کے بح لیت و بالا تھا ثابت ے۔ 

ویل(۳):۔ جب لغن نتن ,نا .حقو كيئ رمق فی وعصرر یک بو ہے اورشن 
نی مر یک حاط + یکی پیا جا تاے اور کی می ہم غير اجان ہے اگ لفظ 
ادكو تن بان لیا جا کے تو کک کی کن ص ری بوک او رست مص ر ری نلک ما ہوگا 
جس ےنم فرب ای لاله آلا الزحمن مفلاو می یں :گر چافظ ار لتصسص 
بذات بای تال ہین پیل یھی مم نیج سے افادة یرتیل رل رت نک 
ہے دوذات جس می رحمت بی و امال ہواور مع كل ےئنس میں لونم خیرم جود ےک شاید 
کول ادر اتکی ایک بل شش رم تک وج الکرال بواوررک یکا مص ران بن کے »ا ى طرح 
لیر ارگ ار تن ہوتے می مصدری س کیک كا لاد نے مو متف مو اک دو ذات جو 


3-5 35 1:53 5355555 5 


غ ون فرش اهاري 


تم ای 
مورت ہواوراس میں لق ہم فر مو جور سب اورال کل کے فاظ سے برافادة وحن وک 
عالاكل رامل اتاق س وتو حید اپا ا وم ال نکر ایک ی جز س اج نا 
> كردياجايك گا سی وج سا ہم فص ہوگالہ ت مفيلتوحيرمز- 
اس مقام شس دوفائند ےقائل گر ہیں۔ 
3 د(۱ )سوال جواب كان میس علا رف 5 
سوال :۔ افاد ہت حيد کے ےآ پکوکی ش رط کے ہیں ءال کے ے فت یرو رک س كوه 
مش ات الباری تال ىمو یا اکا م خی رر نمو ےک گی شط ہے دوفو ل طررح آپ 
تروق كرتل كرآب افادة و جر کے ے ام کے اختصاص بذات البار ىأو 
كال تت و لاالسه الا الرحم کی مفی تو حید ہن چا سے ما لاک ہآ پ اسومفیر 
لو حيرتل یکن اور اکر تھا تین ہم خی رکا ن ہو بھی ضروربی ےا بجر لا اللہ الا اله بھی مغير 
لتو حیدگیں كول شرت ذا تک نام ے اک ضار ٹیل نكل »ون اور نہ بی اکا 
حنم من میں1 سکیا ےک خن کلب تس لا يعصور با لکنه ویکٹھہموجودےاامالہ 
اتخضاد بوچ ماصفات زر یر ی کیا ایک اور صقا ت كلتق موك نسل می و ہم یبال ہوگا؟ 
اب :سن دو رک مراد كرام کے اخنتصاض پز ات الپا رک ہو نے سكسا تس تیزم 
ری ن مواورش کا جاب ہے كما كر چات یکا آل ضار( ی صفات وی روٹس )ايك 
وال ےکن ذات صح ضرق اک ی ےافادء نو رال ے ہوسا ےک اکر چان کا آل 
امقضارئل درچرشش ےکن ذا تم حطر ایک ےءپا لا رال سقضاروژات محضر 
دول مشک ایا اس فاحل در ےکا لفظا اش کرای بل و عام 
وضو لاض ہے بخلاف الکن ےک انی رخ جن سط رج عم ےی ای ط رح 
اس کا موضورع لگ عام تھا تع ولا کے بع رلوم ہو اکا كا مص رات فقا ذات پاری تی 


وو هوجو ووو وومووووووووو 


اضرا اون کرت الیضاري 


24 8262440 26426 ع هه مه م و همع هه 24 4 4-86 6485 40 4 07064 أي 
جن تی ہے اوراس رح لف اجب الوجود تشک مرح عام موضورع لمعام ہے اک لے لفظ 
اکن فی تو یڈٹس ےکن لفط لاله ال منی تو حر ے_ 

فدہ( ۳) کی کا تخیر ہے ےک لانف یئن الد اسم لاء الا نی غر ضاف لفظ ار 
مضاف ال رورت چا ہے تھا لیکن جل طررح مز ف مضا فک کے اع راب ماف ماف 
اليكوديا جانا الق ذال سے ای طم رح نش اوقات ضاف کے ٢ہ‏ ے ہو ے مضاف السگوا رکا ۱ 
اعراب ديا جا تاے ج بک ماف ال اع را بک برداشت کر کے لے ای طر با لتق الا 
سی غير جلا ۶را بک ہردا شتک ں ل رکا تی ین قا نون ےکیٹ یکا جع ب لکا اع وا ے 
اور الا فوع سا حلك اف الکو فو پڑھاگیا۔اورموجود نز وف سے ۔ 
اکت را :ا اس متام یس علا مك زر ونی امش پوراخترائش سج كلل حير یی سبل دوچ زی 
مقصود ہیں ای کے معبودان باطل. کے و جور نی کے سا ترا مک نکن اور دوس کی پیز امكان ہار 
تال کے ساتھ وجود بارى تھا كا اشجات ءاب لای کشک جو پ زوف اس کے وہ 
موجود ہوگی یا هسكن دول میں ے رگ رز الى چا ےتصود اص ئيس ہوا کیو اکر 
آپ موجو دز وف نیا لیس تو متبووان باطل کے وجو دای مول ہے امکالن ان ربا جاور 
اپ مسمکن اقا کے لور بار ی تال یکا امکائن مت ہوا سے وجودبارى تھالی 
ھان کااشا تی ہوتا؟ اک ئی جواب ل - 


جاب (۱) 7 9 9 "ٰ0 
یشک به " انتفی ہے مو انتفی الاله غير الله ج ب بوران پاطل ہکا انا وا وجوو 
پادکیکاا بات موكيا 


جواب (۴):.ٹرکی ن ریس سیک متبودان باط کے صرف امک ن کہ نی تھا 


و و جا 215 ا :2 0 95 9015 218 جا جا 21 5 3 8 


ا ووووفنہ1ر .۱ 
کمعبودان باطل کاامکا ن فو ميان و جور ہو کل وو موجودتی لت تھے بھنوان وکر اکا ن کے 
سات و جو دکولا زمقراردسية انا اب مر وچو دا گڑ رو ضرا نظ رس 
2 ۸,۸ 

جواب( ۳):۔وجودوامکان كر چ عام ا کل رھت ہی لل وجو دخا ہے اورامکان 
عام سيل مب رشق کے ے دونوں ب نيدت مساواة کی سكول معيو وق وی اكول 
۱ جوج امع جع صفاتالکرال ہوم جب ہو رشق يب لصفت امكان موك نو ا کا در کال می 
ےک و جود گیگ امكا کا ی موجودہوتا ےلپ اتر مو جو داش كل سےسممبددان باطلہ 
کے وجودک یھی کے تو راولت ات ای کے طور امک نكو ہو جا كل 

رون لال شل“ جودان ی کی سک روتکو یں صرف سعبودان باطلہ ہیں - 
اب (۴):۔دی تسراجواب ےت رکز وف م مکن کاش کے جب پا ری تقال کے لئ 
امک ھابت ہہوگا ؤدلالت ای کے طور وجود پا ری تقال غا ہت ہو جا ۓگا۔ 

لاو الاظهسر انه وصف: ییہاں ےق ی صاحب رع اللہ مھ ہب ۴الت اورقول عاش راو 
يا کرد سے ہیں اور بجی تاش صاحب كنز ديك راع معلوم بوتا سكول ابول نے اا کو 
الاظھر کباب كلق ل تلك اغ ر عارت مس کور مويل إل - 

مھ ہب با لمث وقول عاشر:_اصل انا لوت اغ ے اورشتق ے رشن مور 
کےا شال تشاع شش سے یاد را ال اله یلع( منع سی عبد اب اصمل میں تو وصف تھا 
ین لیهست بز ات البارى تعالی ایا کم زا ہی ط رر کی اور اس اطلاق م 
تسا اخضاص کی وجہ سے تم لفظ الکو اصلا صنت ہو نے کے باوجوداب نوا 72 272 
عت ہیں ہو رت ط رع مک شان س كمال سے ایک بی ذات مراد »ول ہے اور اس لف کا 


سس ہر و تی نی 


اظ وي داري 


O 7 


اطلاق نري يكل جع مدنا یہا بھی ایا سے ۔ اتم کے الفا کلام رب تمل 
ہو سے ہیں شاشر بارش صلی کے مطا کین اب در اتعال ند کش ستارون 
کے لے ہوا ےا ی طط رح لقال عق مطل ق لرک او رک ے تی ليان 0 
استحا لتا ریا ری تھا ی خو يدن نول کے نام ہوگیا۔ 

07 > بال نس مج بک یا نکیا اب سرادم زا ے تلق ورال بجر ے 
جوابا تک سل ازتردیددوفانندے مطلاحظفر انیں۔ 

فد( )غلب استعال دح پر ہے(ا) غل تت (۳)فلب یف لک یسک 
ایک اف کی عانعن کے ل ےکی ہواوددولذظ هنک میس استعا لبھی وا ون 
رل الک کے افراد ل ےکی ایک فردکیسا تال طررح خاص دیاب ھک ری دوسرے 
فرد مرا EG‏ رمو او رخحل نرک کاس نے کار چوا لضع کے وقت لو افٹاکی 
و مت یک لكي بوي نبل از ستعال فى معن الكل ویک تفر( مين افراوالكى ) کے ات 
الل رع خا کرد پیا ہوک ھی دوس رےفرد پر اطلاق پا د 7 
فائده("):شريااورالصعقىنن:- ٹریا الاتھاتیثروی کر جاور ٹروی 
ثروان موش سجتي عطشان و عطشى »ثرو ان ادرثروی بالدارصرداور مول هت 
ال دا کور تک و کچ ہیں ءاب هنا سپ تک مانا کت مو كثرق جوم مضي كل برا كا اطلاق 
ہا کرک ادرستارے ال یار راصق( نان مگ صو بر 
ا مو کر دید رت ند مر کر 2 
رات ہے ) ملق شت صورت الک مکی ےلین بعد یش خو یلہ بن وف كيرت ناس 
مکی رال ی شد ت سوت وا گل یگ ىك جب اس نے بارى تا لی تایبا سی 
کرکیا ان تھا اي زاشسو_ کا ہے باج ئد یکا اور يا اس وق تک كرو جب عادتسابقہ 


سس سس ہہ سس سر 5 393 


لاف وي ركفن اوق 


ےت کے 
ایآ نی بيلك سال دانے پیا لول اود اط ہیں مھ ہی گنی جس پرخو یل يل نے ہوااور 
بادك تھا ی سک بڑے نان بیافمات سكل بيار ىتا یکی طرف ے صعق ناز ل مول 
اوروور! کر وكيا ۱ 

اب چوک خلہ: استعال کے دوم توقای صاحب رحمہ الد نے دومنالیس بی كال 
ایی غل تیک الصعق اورودسرى غلب نقذ کی ثرياء اورغل یی هبوت ےک ابتراءدی 
سے ج ی سكس يرشت ہو ني زقاضی صاحب كان دومث الول کے ورك نے ب ل عات پور 
۱ کے علاد+شاید یک كلست ہوک اس ما ملق مراد ےاوراکی مال شر یایب کن 
یکن ا ات وشت بلط کی کی پل 000 
ایا نت بات ال ار تیوک دک دورس پا کا اطلا قی درست یں - 

تفلک دوم بنا نے کے بحدلفطالظکاباوجود فی ہو نے هفرق موكيا ال رحمن 
ےک افظ ال يل قلف ری ےاورالر حمن۔ں غل 2 کت رھ 
تما بھی معن یی میس ہوا ےن ولا کے بعدا کا مصداق ایک تی معلوم ہوا 
ادرا عم سے لاالے الاالل لعفي لتو یر ہو ےکااورالاالر حمن کے م فلتو یرد 
ہو نکی وج محلو موی _ ۱ 

بلا ور نس نہب غا لث ییا نکر ن کت ہوااب دوس را درج ےک وال شلا 
نات ال مز جب انناف اج بک کرت قاط صاحب رص اید ننس نج کی اركف 
میس شي نکیا پگ رال باه ساب کے جوابات ہوجاتے ہیں چنا تیت ی 
صاحب رح الل نس مہ بکابیان شرط د اء کے لور کیا ےک لما غلب اجری 
مجراه ا باک کے من سے جاب سنج ۔ 


و5 5555:5555 553 355 


الغ ون ركف یضار 2 
45 95 122 35 42 95 129 :39 25 92 142 85 4079 12 هت 123 12 1980 195 115 85 115 42 82 48 92 195 97 1985 92 118 35 143 825 19 95 32 35 از 05 22 B8‏ 


جواب وم ل (1):# أل رافظ اڈ فت بوتاو موصوف نوج اورمضت بر بت ماگ ای 
موف »الک جواب بي ےکہ جر اف ال اي استعا کی وشت بيذ ات البارى 
تھا لی ہو کی وج سے کولم زا عليز ام زا وا دا كام ال ب جارك ہو کے ہیں 
ہل وی اجام جارك »و کک ہیبش موصو ف ر ےگا اور ت کد بن ےگا تی صاحب رتم 
اش نے لف نش ری رع رحب کے تت ال جوا باود دمر تسريه ييا نکیا اور يك لسري دسر . 
دی لكاجواب دیا جرک در زج 

چوا ب ول (۴):۔ چیم ذال تام تام بوكر می موصو فر پا ہےل ہد الل براجراء 
اسم ءصفا مہو سد - 

جواب وکل (۳): یی فى میں کی ہون ےکی وجہ سے ال شرکت افیا 
ر ےگا ءا لک ی صاحب رح ایند نے جواب ديا کہ چوک فلکم ذال کے ے اورخلبہ 
لکیس ےکہابتقداءجی ےی ایک ھی ی کے اتد ای شف ہ ےکک ددسرے يهاطلا 
تی درس تل فو اس میں شک تکوراستہ ی نہ كاك بق ہم ناور تالش رک تکا ہو کہ بیان 
جب کن می د لال ملاظ کے اج ہو گے _ 

شبات عي غالث کے ولال فلا ےک يال :اب لان ذاته سراد يجتو 
سس نہپ غالث کے رال ملا شکابیان ے۔ 

دصل (1): مع انا ط خان افون ےک جیعی موضورع لہ ہوا کیش اولان ےک و ۱ 
ون تقل فى لزان ہوخواہ رخ الفا کول ویرک ایخ فان کے تلق اختلاف علض 
حرا تکاخال ہ ےک الى ان الفا انان اور شک خیال ےک ابق را وخ الفا 
خود پا ری تقال »موکلام بادكات ےو عم ادم الاسماء كلبق مت ار 


کو © جا عق جح فاج 5 55 588-26 


اغلوي نکلنی ضا 


بب بے 9 9 
كول بش تھا ی نکر ومح الا ظا کا کم کرت معلوم مو اک ابا ما فان با ری تیان ں» 
اب ادا وی ہے ےکہخواو وش الف کوئی ہو ہر مال نیک قل فى وک البش رہوج ضروری 
سے جب وا بشرہو يحرف اہر ارصع تقل فی ال ہو ومع الفاطدکی ع كن 
معا کے متقابلہ می کر ےکا ؟ شع الفاظ کے لے ضروری کرش تقل فى الزن ہو اور 
جب داش بادى تال ہوں بھی معا نی کال فى ذ ہن الیش رون رورس يتل ال و 
الفا ل با تال ی کات فا مس ہو بر توت وفع باس کے لئ ور ليا جانا سے 
كاقلا تت كيك فلا لنظ ے٠‏ ب كرسي مخفو لكت د موتو ونیک کٹ مدنلا مآ گا پا 
.اہ می تھالی کے وقت بھی 7 ل فى بن الب رون ضردربی ے_ 
ف سا ین البشرك قیدایک فا ند كيل مول زان اطورش فقو البشر 
ےوش شرم نے برا تن لا لک ہیں وکام ے نوا وک ہو۔ 

اب تم کے کف اک سل میں می وف كل نامز یل کب ذات پارک 
تال بخ لصفت کے ز جن میں تو یں ہو تی کیک تصیگزر چا ے لہ يعصور با لکنه 
8-9 چ رول 
ےا ا کے متقا لہ میس لفط الدکی ومع كيم کن تو لمال ذ اس بارى تھا یکا تصور پو چ ہروا یچ 
ما اد وه صفات کے زر لچ ہوک اورصفات یی لمت گی ہوتا سے برحال اس ذا کے وج 
ابي اف کی ہوگی نس من فى اور واف افد س كم اتا ماس لت یی تھا جو جن 
می بھی سل وکا کن بعد جس اختقمائ بذات البارى تالی ال طررع مو كرا کا کی 
رپ اطلا تی نيش سے اس می کوک مر نمی خرا و داش تا ہی ہو ں کیرک الله سے 
زا تکا تار فکروانا بی مقصود ہے ء جب ذات قول بی کی سذ ويح کا حبث مونلا ز مآ :ا ے 
زا بادى کے وق تک لفظ رابغ فت جوز ضروری سار چ بعد تش ہزات 


81 8 9 8 20 © 8ہ چو نز وه سفق 


اغ ا ري مكرك اليضاري 


09090600-229 26226090622060 وموم ههه مه هه مه 20990664 
الباری نال موكيا >- 
ول (۴):۔ اک رفظ ی اسل می کم زا بو قر ن یرک ای کآ يمت می تلا ری طور یر 
دویطر حکیخرابیاں لا ز مآ فى ہیں )١(‏ حو ی خرالی ٣(‏ )فی ءدہآ یتپ ےوهسوالل فى 
السموات والارض الخ ان ْ ,70+0 ہو تداءلفظاللتجرفی السموات 
ترف ہار چ رو رسخا لفظ الد ےی کہ دہ الثراً ان وز مین ل ں اورظ رٹ 
سج اقرا رواو راتت ر ا رازم ے مج تکواور وی ت كيب اورعدو تم سے اور حر وث 
موم پا رک تھالی کے منا نے رزو محو ی ترا شترا ہلا ز مآ لب ےک چار مرو رکا تلن 
بيش تل وتا ے اور لاله اسم جامد ے چو نیل سجن رشعل سے بخلاف ال ےک 
اران له یلق مت کا مان رکھاجاے ت دوفو ں مکی خرابیوں سے با ہا سكت ےکر ای 
وقت می بوكوهومعبود فی السموات والارض اسف ایی ںآ کرک 
ملق ربخل ےاورسمنوی ترا یکین یکیوکلہ یبال انت ا رکا ران یٹنیس بک عبار 
كابياان ےکہ بادك تا بی ز ین وآ بان ٹیش متبود بی کی فت کے سا تر وصوف ہیں ,از 
اس سےمعلوم ہو اه اه ۱ 
و بل(۳): :ولان معني الاشتقاق سمسرك دم لكابيان ےکاخ تا یکا مطلب ے 
تد سس وت 
چناج ج ب کی مقام یں کی اف کشت ہونے میس گنک ہو چا ےت ازال کک بی ورت 
دای سج كم كرست ماو رشت میں اش راک فی اورسعنوی ہوک تو مشتزن ہو نکاما 
جا گاود نگل - ۱ 

فاص کج شتق مراشت شتا ات وى موق اس متام به 
انتا یکا تو لکر نا ہار E‏ »اب بلاق ادك ہار سس رش ہونے میں 


553 55 85 55 5 3 ا زها © 5884 


ر2 وی فف یضار را 
5 0 0 4-2 ما :48 142 32 5 9-889٤‏ 25و 95 85 185 12 05 10 05 :2 1 190 80 9 185 45195 :119 9:18:87 ا ز رو 
شک قفا ورد سےمعلوم ہو اک | ليم نیاق ورف لله ب لفغ ومحنوى من ست مو چور 
التبا بلس 

اب چوتھادرجشرو وال مب ی س ےک لفل الم ذال ے اور تول جہور 
تون ویز جار مل بن احفر اميدق ونر کا ے ۔ ان عفر تك طرف سے تاش 
صاحب کے دلا لكا جواب درخ( ہل ے۔ 
یل (۱) کا جوا ب نم ر(۱): کیل تبلق معن موضورع لک تقل نی جن الیش ہو 
ضرورگ ست ورو درس تی ہوک اور وم وک صورت یس می وتا ہے ا سکاجو اب 
ی سب ےکہامکان تو الى با تک س ےک وان کے لئ وكيا جاۓ بت ز ہن 
البشر یہو ہار ےن بل اکر افا ده تقصوون وین امکان می رمال ہے کول پا ری تقال 
قارب 
( ۴ سلم ٹاک امکان لال تی وضو ليب ل رور هاو رپچ را مک دلالت کے ے 
اکا ن قل رو ری جين ہم کچ راما بو جاور یہ مات وكالى ہوا ے بقل 
اد ضرور ی یکوک کن موضورع کے لے اکا اقل پا کی کو قوى وا م جوتي 
ہے اورذ ات پا ری تا لی قل ریچ ماصفات کے ذ ر لی لبذ ااي ات قل وہ ماکے مقابلہ 
يكلم ذال ہوکتاے۔ ۱ 
(۳) اکر چپ نے لظام ڈو اسل میس وصف ما نکر بعد می عم ذال گی اند یبا ےکن 
برك من یلت حييل وي اك لقنتس ہ کیو اتا اف یکی یکل اجس می ت ہم 
یراو رش رک تکااتال بال عليز مفيرلته حيرئل وج امال تب بوكاج بک یکم زا ہی ر ے۔ 
جواب دی( 6۳:دم ذال مات ہو ۓےبھی؟ بت ره وال فى السملوات 


98 5 35 855335: 33533555555 


الغ لواو رتفي نيضار 2 
345 98 35 35 35 35 232:15 35 ماش 2 تھے ا ا 8 120 82 ات ا 82 115 02 18 ا 927 35 ات اتا 85 39 099 29 39 39 
والارض کا ے اورخر الى سنوی دوفو ررح كيس ردقن فى قراس 
سک ضار سے ج بکوگ یگ ہام جا یا نی فت نص سك سا تج تور ولو ال وقت جار 
رورا ام جامد کے تلق ہوا ےا سفت تھ کا یا اکر ے ہو ے چنا نیش عرکاقول 
> ل سڈ غلی 

شاع کے شم رش عل یکن اس د کے ات کول اس میں صف ع صا ل اور رک 
( ملآ ور )و کاھا لي اكيا>- 

لا یہا كك لف الہ انی ف ص مخبوديت کے اور ےا چا ر رورا 
کے تلق ہو کک _ 
او رصنو ترا یکا اذالم وک جار جر ورتا لوط انش کے بل ہیں پارتاق 

يعلم 7 رتل کے ہیں اورهو الله پل ميل م کے درج ل إل عق لف انش ارو ے 
برل _چاورمپرل مرا ۓ برل ےک تد اوريهلم سرکم و جه رک م کا پھلت۹رے۔یا 
تی ڈراو ل ہے اور گم دالا بای جاور بردو يبس فی السس‌طسوات 
والارض کا چا ری رورم لتاق ب( زادہ) ی اشتحال جا تا سے کرک 
وجهركم كبوا« وسو جرآ الول ٹیل مول یا ينول مل _ 

ول () كا جداب (01:-1 پ نے ضا سک امت جرا اشنا ق ثاب کیا ہے وجب 
ایا یکو ابت کد لکیاادرہمارکی پٹ ال يل سكيم ذال ابا ضرورى ےج بآپ 
نے جواز اشنا ل غاب کیا تق جیب تام شدرتى- 

جوا( ٢):۔ا‏ سکا مق جواب بی ہے جس اهتنا ات کے ددعم ہواس کے 
ات کے اك یفیک تاغل وتو یک ینہ کیو ہآ پ نے اقا نکر وصفريى 
سكن بس تكرنا سب اور اشن راک ٹفظی ومعنو ی فس امتفاق کے ے تو كالى ےلان وصفييت کا 


جو و وج 55 © © © 5 55 28-82-824 


اہر ہیی موی میا ووچووودەروجو وع وچع جو جو عق بقع 1747 1 و لق 3 لو جع جو وق 


اسآ کل ہوا وصفررت 2سکتن کی دلااتگی ذات اجب 
کہاختقاق لتق و یکا هونا ضرور یل چنا حت ءآ لات ہیں م ضر اب وی ویش 
نان سن وبا کل ابا ۱ مخت یں بق بی 
ےکن الله ال 3 

صب راع :سو قيال اصله لاہا ے نہب راع وقول ماد ی شیا نكاد سے و لک فط 
ع لس للدم ای زہا نکالفظا صل مس لا تھا 7 یی الف قور سكس| جج جن س کا 
کل مود ہو ےکا تھا جر چک رب منانے سك یل ری ہیں انط یتوں میں سے ییہاں 5 
طر یت اغا رکا گیا س ےک الف قصور موم کرد ایا پا لاه ناب« بترم بل الف لام 
1 الرادغا مك سل الله ها یا 

نال کے بار سس بفض لتقا ىكيارهاقوا لعل ہوئے- 


EES aE E a EE A REE‏ ا 
ی يف لاق فة روز نا حلت تون 
أ ادر اک لفظظ الہ کے ذا کے بذ سیا جیا كارا لفق رپ وم مرو فط ر یقہ ہے ۔ او کہا گیا ےک مطلقاي 
ا ڑھن روف ساود اي کے (لام اور ام کے درمیانی مان )ال فكو مز را ایی نشی 8 
غاب اطعا شخ خیش 2007 


سسجت سے با ع ا ری دس مد م ا۵د 


سد ور و ا ور ےک نس ہے لاس جع پوو مو سج ید SEE EE‏ چس EELS‏ 


5 بوک دای نوی | ارات اللْدُبَارَكَ؛ ۳ 


دما کیل نت کت ا از در ركس سا می برك تكافيضا نكري | 


اي مصنف:-وتفخيم لامه سے الرحطن ال حیم کنیا نکر ہے ہیں۔ 
و تفخیم لامه.ت وحذف الفه تک ای راء تکا سل ييا نکیاو حذف الفه ولا 


93 5 5 55 5 5 ات 6 55 55 


وی ني دض اوي 


09 رز نل رر سس رہ ہر سی 8:46 5.505 :ها 
ینعقد به تک ایک نی من عندالشوانحخ كاذ ےاورو لا بنعقد به هدوس > نی مت کا 
ياك سکب : 

KOT‏ 2 لامہ ےو حذف الف تک ایک ستل قرا مایا نکیا 
جار پاس ےک ہش جو رجن الق راء کی ےک ات بار تی ماو مال رتبت ذ ات یں ا مت 
زا کا تقاضا ہے ےکہلفظ الله مل ا ےرم ون ہو تے وقت لام کدی ہک کے ب ڑھا 
جاع یا کرام عفرا ت قرا کرام پڑت ہیں »پر کے نز ويل تو مطلظا پر رن ضروری 
ےشواہ ماف کسورتی کال تین بات ےک انیل کور ہو تے وقت کر نل 
کیک کرو اف تفل ( د ين )كدخ انق ہاور لام کر کے میں علو ہے وغل سے علو 
کی طرف ات ہز اق کور کے وقت ڑم کیاجا ۓگا۔ 

معل(۳):_ و حذف الفہ لحن تفسد به الصلو ة ےی نی عر الشوافع يا 
زک ہے و ےا بات يرا تا ےک لفت الہ کے لام داء کے درمیان شد او دای ال فکو 
طز فك کے پڑ ہناش ی ےکن اش میس اتا ف سکیا ال سنا زگ فاسدہوجائی 
ہے ی ؟ عند الشواف نماز فاسد وا ہےعند الا اف ماز اسک بو _خطرارح شافع 
کے نز ديك عزف الف کے وق نماز اه فاسد ہو چا س کر ان کے نز دک سورت فاتك 
هافر ہے اور هاش جر ءفا ہے ادرقا لون ك انتفاء الجزء یستلزم انتفاء الكل 
( ج مک اناگل کے شتا کو سم ال اجب ال یوم فک میں گنو اس سے افظ اش 
اريس مرك تو مس اش ایی شی سےسورت ف اک نام کوک مم ار جز فا کہ ے اور 
افش جب فا تشر و و ما فاس وجا ےکی ۔اورتعطرات احناف مز ربک 7 
ھی رور ےکن اس سے نما زفاس لس مول ول اف الله کے اشنا ,لاص ےبسم دک 
انا ہوگا منک کشا حا پیش هليذ اناز باق ر ےگی۔ 


228 ا 3 © ذا اس ا 3 818 5/4 3 3 5 13 


لغری نک رکف رز ار 


بر نہ سر 28 5 
مسل( ٣‏ )ولا ینعقد به الخ :یبال ے دوس نشی ملکابیان ےک اراو انان لفط 
ان( يكف الف الو عاف کے س ات کیا نا اذ ال تما یل موك ج بتک نیت 
دوک سالک بز ف الف وسطائی اصع لفت ٹیل رطو بت کا سے اور جب ایی لفظ ذه 
مولو و م ترو کنا ل سے 9 ما ا اوم لفظ لکنا مل تیب م ضروری مول ےج 
ات وتلقانون هلم الضرورا ت تبیح المحظورات ذ ضرورت شع ری کی مناء اقظ الله 
کف الف وسطال بڑھاجاتا ہے ج اک شاعر کے شع ر ۱ 
آلا لا بَارَىَاللْهفِوْسْهَيْلٍ (قاف اڈ بارک فی الرْجَالِ 
:داو الت تل سكن میں برکیت كر بل یل الہ دوم ۔ ۵ھ فک 
فيضا نكر ل- 

السك پل سمش ے۔ لفط اید كذ ف الف ےه دوس ےصرع ل ای اکل 
عالت یں سے شا ع رکیل کے بارے بی عدم برک تک ددع ا كرد با سك جب اللہ دوس ر سے 
کول کے لے برک ت تا زل فر تاس وی دار ےا كك ميل هرق تیا ر سے 


لله الله نا الا ال ال 
1 ل2 از 
ال القن للا لال 
لله الله ل ل 
ال از 
ان 


© © © ج » 1 © جم وبي" و و و 5 و 528ھ 


اغ وي فک دآفي التضاري 


للتتلیببلنیبلتنتتسکبلت تنب 


0 7 ۱ ۷ تن 


سے وو سے ےجس سے کرت و ا ا ا 


تست سا داتس سس یسوم ےہ بات جس سس چس سب مت اا کسی سس پت 


لته بیرق 02-222]) 


| ادم حت کا یوک تا کے نل اور ایا یلا ےت 7 


ےہ ه ۱ 


الاقام شڪ تا 


ل 
اف اش مصنف:۔الرحمن الرحیم ت السحمدك کنفربباصف ریش قاتیصاحب 
رماش تقر یاو ال جیا نکر ہے میں چنانچہ الرّحمن الرحیمت والرحمن ابل کک 
عبارت بالا نبل پا ما لکابیان سج (1) رین ور مك یف یتین )ماد ىمع یکین 
(۳) مادواشتھ تی یقن )٣(‏ ماد لغو یک تن (۵) یک سوال مقدركا جواب۔ 
متل(۱)رحمس ورحیم کی تن اسما ن سے تی بيضاو رم 
لغوت نكرب إل چنا نر حمنيروز ن عسطشان بالا تھا لت ش رکشت 
نس ل مبالذكا ہے اور رحيم کے مرول .بب او نیل ويروا سوا حم الفا 
لہاان تر ارد ے ہیں چک چند رك تین اسکوص فت مه کا یق ارد نے ہیں » 
نکاس میں اشتا ف نھااس کے ای صاحب رم الله نے صسفتسا نک كا بک 


پر ری ہیس یت 3 8 3 ذا 


الغ وي خخ داري 


ده 20000005565290 309 09 04658545 00 20 6 09 99 6 وھ 
امسمان یات ل استيعاب مان ا EE‏ 
مف شب کے ین ول - 
اشكال: علا مسبو اویل ور ودوسر ےشقن اتف كر ے لصفت مشب رکا عیضہ 
ا زی باب ےآ ا لزنا جل رحيم باب تع رک سے ےہا اتا چ جم فلان فلانا. تو 
. آ پک ا لکاحفت مف رق ارد یناد رست ںی سے ہکم فائل بی ے۔ 
جواب کا زادہ سل ان كالول جواب ديا كلامز انا ی کاب الفا مم اور 
اتقو ب کی نے ما ااعلوم می ککھا س کہ ر حیمد اسل باب مدکی سے بی تھا لیکن بعر 
ل تعر جم ست لا ر حم( بروزن شرف ) ارف دوس العف عفت مشیم 
کا حیسم باتو زک گیا او ری قاعدها ابد اب می جار ی شد ہے جوا میس متعدی سے 
گنفت شبہ کے ہیں شار فیع الد ر جات ال می باب هرک سےتھا تی بر 
دک سرد باب لا زی رفع ل طرف لیا * ہوا۔ اور کرم فت م ہک 
اخوذكياكياء جنا ند رفیع الدرجا تک ےرفیع درجانه(ال کے در چات بلندہوۓ ) 
نہک رفيع للدرجات. ۱ ۱ 
ستل( ۲ )سراد اک :نبالل ملع راو یک نکر ر ے لكا 
رو رلفظون میں بال تی لتصورہوح سے ٣یق‏ رحمن میسو مزع شي ہو ےکی بے 
مال ہوتا ہے او شم کی جوا فائل مات ہیں وه "ی مال او زو لاز مقراردسيية ہیں 
(اگر جرم فا لک أسلى ردد عدو کوت ہے :فرت مب اورم ال می می فرق سے 
کرصینءصفت مشیم می دوام و ترا رک ہہوتا ے او رم فا می تد دو دو کا ن ہوتا 
ے) لبذ امم فکادونوں کے حا بنيا للمبالخةابنا تح ہوا۔ 


و :55:5 :3555555 


ضوف ي كركف التضاوي 


ج 6*9 29282888690 و 


_ وأجووعوو و 37 ج ھ25222 BRE‏ 


متلہ(۳) مادواش اتی کیی:۔ من رحم سے والرحمة فی اللغذتف ادهافتاق 
کن سه كوول سے ر جم رح باب شع ری سس شقن کل غير يه ربا یکر کے 
يرحم الله عبدا قال امین پھر عصنف _ یربک کے غضبان من غضب والعلیم 
امن علم اس مقام مل تین 2 قائل ذكر ول 
کت( ):۔ چوک ر حیسم کے بار ےش اختلافتھاائس ے ماده الى واسل یکا ذکرکرتے 
ہوۓ سن رحم ( کس ران کہا کیرحت ردول ر حم( ان )ےر حسمن 
بناہے۔ اکر جرتطن یقن عیغصفت مش ہکا ےا كار مطلقا صن رحم ( باقن ) 
کرد یا نو تمس بھی نين ہو جا اہ ع عفت مه کا ہے اوراشتا ف كنأش 
با شرتق مارک ربت ا وا لماکت استعاب نکن نکی ينابر من رحم 
(جس تین )کہاے۔ 
کن(۴): رش تا سكل طررةغضبا نکیل زی چا یع رر حم نکن 
ھی لاز ی ہے او رس طط رح علی مک تح ری ہے اک رر ر حي مکی ی مع ری ے۔ 
کر( ۳):-غضبان يقر يمنت ہکا ے اور تمدی عضب ے ٢وہ‏ غطب از 
کر فآ بارحم نیا ی لر جا در رحیس گر لی ٹن کی يدوو لكل 
اناف مول نشل براب ہیں علیم سی اختلاف ےک ام فا۶ للہا لے یا ص مشت 
مش ہکرمتع ری ےر و وکر لا زی ی اکر غت مشبہ اخوؤ ىك ے۔ 
متا( ٣‏ )غو ی کی تنس وال رحمة فی اللغة ے واسماء الاو 
شقن ےک رم تکالفدیستی ہے تقل القلب ہوا اورانعطاف وميلان ات در چ کر 
رہم بر سك افيرش ره کے ءومنے الر يع سح انتما دمي کی اکہ رخ مک ن انعطاف و 


559 ر3 دردے ےڈ وکجت88٭أوجھ 


لا رل وي وك ركفي رارضاو 7 
© 5 8 8 نان ساس 15 ساسا شاو شاف سای ار 5 30 اوت اف ون وج ون نون ینتا 4( 82 39 927 
جک ہا ےکا آ تا ہے تیا جانا ےر حم المرء 3 ال گی ےکی طرف مان :تایب 
کس رالیا ور رای چا اد یرای از برق نون کے وان قعل اور فع لو 
فعل بڑہنا جات چا ازجم اودر جم پڑھناجائ دا ورعد یش ريف ل جهن ملک ذا 
رحم محر م ولا نا مپراگی صاح بتو رح الہ نے شرب وا کے عاشي لھا ےک 
جوا را نموت عد یت رک شر یف میں تا ےک م حرم لضفت ذا کی ينابمو رع بڑھناتھا 
من ساتددانے پڑدی لاوجت الكو بجرور بذ ساكها ے۔ 

مسل(۵) سوا لکا جواپ:- واسماء الله ے وال رحمن اب گی تک ایک سوا لجاب ے 
سوال :رتت صفت با رک تحال ے اور رھ ت کا ہآ پ نے رو تلب س ےکیا ہے اود بار 
نما یو رت وقلب سس مزه وم رآ زی طرح دوس ری صفات جوک ہکیفیات نفسالى والى ہیں 
انك اطلا قي ىبل ذات ری تا نویس سمغت جا خضب وفیر کی صفات جن 
ینم وبرن سح ہوتا ے با انفعالى مش جودوسرو لک اث قو لك ےا نک تضاف بذات 
البارى تا ی بس ے؟ 

جواب :ان تا م صفات(جن ب لكيفياتنفسالى ہیں )کا ایک ميرأءابتراء اورسبب متا سب 
اوردوس اتی سیب اورا ہوتا ے بت رح تک م راوسب ب و رق قلب ےمان ی وغايت 
اورصيي نش واحمان ےاوروہقمام صفات نج نکااتصاف ہزات اليارى کے سا تھ مولبطور 
مبداوسبب نہ وت وبال مراد ايت ومسوبات ہوتے ہیں اور ذكراسباب ارادومسیبات يهاز 
مر لک ای کیم ہے لا سراد ينا ہوا ءا استھار لي س كديفي پر تال 
يفير لوق کے سا تیور اورا ل واستها رو ثيلي کت ہیں اپ ارولو لظ رلقول سے ان صفات 
کاب ات البارق کےسا تج تضاف موا ۱ 


2 5 5 555 5 5 55 55 رس 5 818 35 3 


فا سوہ 


و الرً خمن بلع مِنَ الرجيم »لا نباك اتا تل على رة 
| اوراتظرحمن لفظر حیم ےت یاد یال ہے اس ل كبن كو ذ یادن لاش کی ET‏ دأ ۱ 
نی گمافی قطع رطع وکباز وكاو زذلک (نم بوخد تاره 
جاک قط دقع ناژ از --< را يست ىكيت اس لجال ج | 
بغار كمي » ری باغیتار ية على رل یلا رحق 


أ اورىاكيفيت کےا ار سےء بل او لک بیاد م يارج لمن السدنیسسساگباجا_عکا 


م رو 


ال ان عم امین والکافر »وحم اجرة لن بخص الْمؤْمنَ 
310111111111111 
دو( تک رصت )موك کے سات فا ہے ۱ 
وَعَلَى الثاني قیل :با زرحم من له والاجرة وَرَحِيْم اليا ء لن العم 
ورغ ۹ رحمن الدنياو الأخر ة اوررحیم الدنیا اک رت سا ۱ 


: إلى الاغلی ۰ تک کی الڈُنیاء 
0 02 رب يان مغن الْمْنْعِم 
اوراس وب ےک لفظ حم نگ كم کے موكيا ءال لن ےک افظر حمن بلاشہ ال کے ملاو کی اور 
تک س۹ نج 


ا قاق الم 


غ وی ف داري ۱ 
8 © 55 085 5 85 538 55+ 555+ 23 55 5 55555185 55555 5 36 2 


28 
جو رمت کی انها کو کے وال والا جو ءاور برس اش تال کے علاد هک كا ب صاد تس آ ٤ای‏ 8-0 


و ص اع ال و ار مر ا و 


مَنْ 411 هر مُستعیض بلطفه وانعامه بريد به جزیل واب او جَمِيْل 


دع ادا عع ع عع عع ع يد سس جع توتو ساب بس ند لد سس عدت ی ت اگ و يدس نیہ وجب ای ہے سے ری ہی سے یہ ا ت اس ت س س س 


١‏ جوا تا کار و وق مب مان ارفا کے سا تن کول بك نے ولا ہے اس انیا م کے سار 
بڑےاا بکاارادہکرتا ے يا ىلت ری فک 


داز ترا مت زب لل سرت 


می سد یی سد ت سد سات تت ست سکس دس یت تست سب تست تد انام مر سج سس سرد بت سو کہ ود ابد بد سد سد سک ود ص صم سد هه 


تا ت یع سر ت ت ا سو ت ت سس سد نشسوچسو ا مسو ہشیت 


سے 0 ذات ٠‏ الم و وبق وَل على ال وَالدَاعِيَة | 7 


۰ سے اس م2 رات اور ا کا با جانا اور ال گی اسف برفدرت اور وه - 


1 


انتا غ بیقر یک من تزع اد غیرة .اولان 
لع صل مون ہے و یرہ وغیرہ( یمام چ زی انش تدای )اس كلوق میں اوران چز ول پاش تتا کےعلادہ 


کول هتکن رکتایااس ےکر 
لومي مُا دل على جلایل الیم وَأَوْصَلَهَا گر الوجیم لیتناول ما 


جب اش یڈ ی يد تمتو ل اوران کے اصول لزا كر ےت رت کو( مر شر رکاج اکان تو ںکوشائل ہوجاۓ أ 
ر اج 7 و و 2 هام یف ۶۲ 2 وو ور 

رج مِنھا ء فیکون كالتيمّة والردیْف له .او للمخافظة على رس 

۱ جور سل 3 یں بل رمک زار اورردیف کار ہیارک ولآ اتکی گا فش تک وج ے( موخ کی ٤‏ 

ألاى اهر آنه یر مُمْصَرفٍ ون خطر اخیضاطه بالله تال ی آن 

۱ ادا تلی ر یی کر غیر تصرف سے اکر چرا لک دا كس ”وض مدنا الل بات سے مال ےکا كل وك أ 


92393933553: 5۵ 75 


الغ وي ایض او 


اہ سر رہ سٹیڈ E‏ 


گرد ی 


E بے کس سے سے حا تا یل سے انید لو کے تاج‎ E SE 


سس اس OEE EEE EBES EREN‏ تک اب مھ 1 0 


سب نز ارام ور که 


yT‏ ےت 
اکن لواش تدای کے کل شخو ل کر ےاورصرف اد تھی ی ے روطب ے۔ 


ا دبک 
را مصف:۔والرحمن ابلغ ات الحمد ليك وا رسا لبيان کے گے یں 
1 تذل ے(ا)والرحمن ابلغ سے وانما قد مک بلاط ےجنس يل 
الرحمن اور الرحيم ےد رمیا ن فرت میا نکیا >( ۲) وانما قدم ے والاظھرک ایک 
سوال کے هار واب ہٍں(٣)والاظھرانہ‏ غیرمصروف ے وانما خ صک وکا ایک 
سل با نکیا ےجس میں افنار حم نکی اص کے لاط قن (7)وانما خص 
التسميةت الحمد انگ ایک سوا لكا جو اب ے۔ 

سل (١)اثر‏ حمن اور الرحیم مل فرق :-لفئا د رحمن اوررحیم دوفو نک 
الگ الگ ے ج صاف اورا ےک رحمنکاعیذمفت ونا کما مر اورعیذ 


وووووووووو ور سر ین 


قاری نت نف ايضار نبا 


© :8 6125 15 1 1 :1 2 :9 2 2 :18 دے ‏ (222ھ--2-2٭227 222۷۵ة222-ت هو وی 


صف ت عشب می دوا مو اترا پیا اسف حيس ام فا لكا مین میات سے 
يفت مش ےل كرجه مكل میس دوا مو سراد جين پک گیا رحس من می زیادواباخیت ے 
کتک بود كينا کی ياد مش کی ز یادف بر ولال کر فی کیرک الغا ظط قا اب اورظر فکی 
بار ہو کے ہیں اورمعاٹی شر وف موت ہیں فو دسحت الب وظرف کے باوجو رک مظ روف 
كل موثو تر فک وسع ت تبك ہو جال ی اذ اجب ٹر ف( رن )کے الفاظایا روف يال 
وسعت ل مظر وف( میتی )کی وسعمت موك »اوراى تاعده > با تت بیان اور تبیان 
ل فرق كس ہی ںکہ بیسان بات بلادسل او قبیسان كر دصل سے اک طرں فطع سب 
مطل کا اور لع کان ےکثرت ےک با کل دو 1 سے 
بہت بذ ايان اس قاع یاقترا سب - 

تال پکا قاع ونان ل.ز ی دی لفت دال مول زيادل ی لک حافر 
اسم فائل می سبت ح صي فت کے بز یاون افظ ےکن پا جووال کے الا میذرعفرت 
مش حفر ےکن مل زياول دادر جو کہ 
گرا لک نز راسن الا ۔ ۱ 

چواپ(ا) :مارا ترهش کلیس جور حم نش نوک حرط لل ابا - 
جاب (7): تی جاب ہی ہےکہزیادستولفط یاد تن يرال وقت دال مول ے جب 
ووو ل كات ايك بی مادے سے مشتق ہوں اورایک جیگمردان کے ہوںء حاذر اور حدر 
دو لكاءاده كر ایک کاردا شلف ہی ںکہ حاذرام فائل ہے اور حرف شیر 
ے کرای گر دان کے فاط ہد تےتذقاعدہ پاری مت چا عطشان اور عطشى 
فرحان اور فرح ایک تی باد سے کے ہوک ر ایک ت یکر دان کے ہی ںک رولو ں غت مش سے 


یبال قاعد ہکااجرامکر بل کےاورعطشانو فر حا نک نال کان یک لب ل 
19 5 45 35 ۵ و و 5 :5555:5595 


ار بت قفش ار 


٦ص>.>ۃ ‏ 99 © 09101 رر رر رر رر 0 90 5 29 © 9 695 یں 
وڈلک انما تؤخذ تارة الخ :يبال ےلفظرحمن میں ابلخیت يكت کیان 
سے ہک ابلشييص دوطر عکی ہو ہے (۱) كسب المي ارات کت افراد(۳) سب 
لیف توت افراد_ 
اوراقظر حسمن دولوں اختبارے اخ ےلفتظر حیسم ے؛ا باغ سب ید 
والمقراركا مطلب ہے کھج من ۹ ۳1 ت ول کیت زياد مك اگ رمق ارمرح وج کم ہو یف 
یکم ہوک هکیت کے فاا ےر حمسن ا لك بلغ کر اس ےآ ارم تکرش 
جناي ر حمن الدنياباجا تا سے اورد نيال رح نکی یں کرک شید پا سے فان وناج 
كول دا :ایک سلا يردقت چا د ہرک ی ظابرق رم تک ومع ترا ہے۔ 
اود رحیسم الاخسر ما جا تا كوك وبال رض ت خویش موك مين کے لے 
منم ہو ےکی یج ے یگیم مول بت ان رحمن کے (۴) اباغیت سب 
لكيفية کےاختہار سے لفنار حمن می لکیفیت کے فاط ےکی ابلغيت ےکرک السرحسمن 
الذی قويت اثار رحمته چنا رحمن الدنیا و الاخر ؟کہاجا تا ےلو از وی توں . 
كتفت كاك ول حا ب ںاور وتا وی یں پیل بو ںاور ترز رحسمن الدنیا 
و الاخرة ےی رد ری شیم و لمت مراد »رال رحيم الذی حقرت 
انار رحمته جنا جرحیم الدنياكياعاح ےک فتقاد ناو یں عطاكرح جاو سے 
مقابلء يلتق رو لا القظ ر حم ن يفيت کے لاط ےگ رحيم سے اب ہوا۔ 
مہ( ۲):- وانما قدم الخ :يبال سے و الاظهركك ایک سوالل کے چا رجاب دب 
ال لتقدم رحمة الدنیا ے٣ل‏ ولانه صار كالعلم ےلان الرحمن تک 
اث لان الرحمن ےار للمحافظةکءاورران للمحافظة ےوالاظھرتک۔ 
سوال :- قافون س کہ رمتا م میں ترق صن الا دفی الى الک مو ہے ل پان یبای 


664 602 55 5 6888 2889ھ 


ازفا ری فك يلارن 


HBSS Ss بل ا‎ 


نار حم ن کو و ج علومنوی کے مو رکر باق ی ر hE‏ 
أب نے عسي سکم رحمر وترم اور رحيماومة کی اک یاج ے؟ 
واب (۱):- رہ قا ون سکم سين بض اوقات جب ا کے متها يلش کول ا كلسو جور 
بوک وج سےا کے غا نلاس چ نچ یہا کی قیفر 
خلا فقا نو نكي اكيا »هت ہیر جل لظا ر حمس نكيت کے اختار سبط ےکی ون ا لک 
علق دنا وآ قلات دول کے سا جاور ر حيس اش باتقبارمميت کے مر فآ فرت کے 
ساتھ ہے رحمن می دیاکاذکرجھی ہے وکهقرم جاور رحيم #ل‌صر فآ تکازار 
جاور مره ےک رجف نک رصت پردال ہوک ىلق مد تی سے ہوا ہے انار 
کو مق کیا جاتاڑےا ل لفظا بر جوامى رتت بردال ہو یک علق مرش سے ہو۔ 
جوا( :)٢‏ .تفم تا ر حم نک ر حیم سےا لے متا سب ےک جح سط رح لفقل اللہ م 
ذال جاور شش ہزات البارك ہے اک رافظ ر حم نکش بز ات البارق قال ہے اذ 
زرم کے چا تال سكل من سب بی تیا کے جوا سم اع مول اگ واکٹھ ماک ہی ذک رکیا 
جا اور بعد لاعف کوک کیا ماس 
فا ئرم:_لان معناه المنعم الحقیقی ےاولان الرحمن لماد لک افظالرحمن کے 
ساتیراحضا اوق ی بيضاوق نے کیا ےک لفظر حم نا نصا بزاتالبار کول ے؟ 
داق ا ی ہے ےکاقت يبل لف السر حم نک سب ووذات جوم ہواوربراو راست 
تھا مکی جاور رصت وهب را ایی اگوی مو کہ بح كول رجہ رت پآ نہ 
ماد محال سس ذات رل کشک رای ےھ ۱ 
رحمن کاضال یز ات‌الپاری تک 

اب ری ہے با تک افظ ر حم نک اطلاقی پا ری تال كا سوا كيو ت ہو ؟ اس 


85:5 3:14 5 5 3 8 5 5 5 ۵ ۵ ۵ 5 5 55 © 5 8 


راو وت ار 


سب جا 0102 21516 رر هوجو :8 مت تب ہم مت 5۵۵ 555و 
کار ما شاف رس سے کہ انعا وہر 
انی کے در انا موی کا مطلب س کاک رضت داعم و ال یکر نے س ىك كول 
متقصو ون ہو پیل فطل واحرا نکر ہین علي سكا يار فقبر یود کت بو اوداك 
رصت و نیو ی مین میں بولک ں کن کوک سی دمک وش ضرورد یمقصودہوگا 
(۱) اب یمن اکن الى اتی کرادم جك تق الكل تيك یاراد سکم با 
تال ی تیا مت کے ون ہت زیادواجردبیی گے مو تی کا م پراج کی ای یز خرن ہے۔ 
(م) من اقلق فى لقصو و ہوک نتن ارول مھت جیما بے وتو ف )ر یا کار نو دہ یبا رده 
رت کدنا كلوق ری قفري فکر هکفلال بہت بای اد رل اوت چ ہے 
امیدیی ایک مكل ای ہے۔ 
(۳) مزیح رقة الحضسی ة اراد هرت اک بہت بڑ ےم رکا آ رل جوطالبرضاء 
ای موه جب ایک نم بل ریب اود کنا ہو اس کےقلب ٹیل ایک رک یاون س ےک ہشیش 
۱ کی انان مول او و ما ول اور یگ اسان سجن ال بے اد ےگ 
۱ خر کر جا اورپ بکی الہ 
مقصودہوتا سای | لش ول بی ہے۔ 
(۳) مزیح حب الما ل عن القلب راد ہوگاء شی ال گیب وگ راگ کوک یکس یکورے 
لخبت ما لکول ست لنچ رتا چا یش یو من الامو ہے بل قم هک سے منزرہ ہونا 
فتلا زات با ری تما ىكل شان ےکن فطل و اخرا ن تقصور وج سے هکم کشا 
جک یں بر ۱ ۱ 
)"تمق فقا ات پا تا ی »نوی نين لز سف رف کے درج شل واسط ی 
اور یی تن شک نتاس ہیں (ا تم دنياوق سک کا اها مکرر ہا ہے دہذات رک تیا کی 


جج مع جا ارق وق و 9ج 4ھ 9 4٭ا 


E‏ لن ايضار و8 
18315 125 و و و 19 18 ١15‏ وہ 175 173 92113 117 15.32 15 118 5ے وجےے 3 1 2( 1 119 117 112 1208 187 175 7 95 23 
طرف سے »اوروجو وأ تھی بارتقا طرف ےہ ا۔ 

)٣(‏ اس مد تکارت جیسب مول اعطا مد برو وی بارتقا طرف سے سب 

(۳)پا‌تعال نے بی اس داوم کےقلب میں ووجذ ب پیر اکیاجواعطاء پر برا تدر ے۔ 

() پاری تال نے ام م وکا قت سے فا کد واٹھا کے 

(۵) ای ے تو کی عطا کے ہیں سس سے اشارا م عامل »وه جب بسا ری چچ یں کی ارک 
تال یکی طرف سے تم نوی ت سفیراورواسہ ہے ال اور م شتی تو بارى تھالی دی 
ذل لبذ ان دد لين کے ينس چان کی وص تنظ ر حم نک ختقما ل بذات الب ری تھا ی ہوا۔ 


چواء )ار لاان الر حمن سےدوسراجواب ہے ءال بی ہ ےک افظر حم نک باعقيار 
که سک دیما سل جات ہے ےک ببسم الال یں ت دیش کیان کے لئے موعراو 
یت کہ لات و یکی مھا سے نے فط ذات بادك تيمك ا بسو الله 
مسا یا رتست يارى تی اور ےک بج امم رک کے لئے اورا کا تاضاير ےک متا مکو 
کت ہو يتلم ذالى کے بعد ام صف کا زک رکیا ہا ے تمس میں انا رتست پا رک تخالى ہواور 
الرحمن يلل جل ل مک لظ رحمن کے بعد ایق ہم پیات تتو بطو رج مون 
اه مکر سے ہو لفظ ر حی ےکا دک کیاد وم قھاک جا تم کے ی لى الا خر٭و 
ال نیا ابی تھالی ی ین شا يرصغا نتم ارام پاری تال دمو ں5 ا كاز لكر 
دہ کہ لوم دی کم مکی ال وا کے ی بار تھالی ہی ہیں می موا فاعلم پا 
عبدی كما علمتنى انارحمن لب منی عظيم مهماتک فاعلم ی رحيم 
اطلت منى دقا ق نعمتی۔ 

واب( )جاب رات را کے کک کے مطابق ہے احا فک اس م نكو بقل 
نو كا زيم لفظار حم تل لفتار حیم ال كك کہا کرو ]يات م اداشر وفوا لآ پات 


اس اسم ہی سو 293 135 


بب یو و ۱ 
وت سے مت سواہ 
سکن اور ال یا سان ےتا نکی موافقش کر ے ہو ےر حی لوم کروی 
کہا لک ]خی سکن ے إوذت ولف اور لبمس اکن ے اور اگ ررش گرم کر ےو 
موافتتت درا - 
ميل( ):_والاظهر انه غير مصروف الخ :يبال ےوانما خص تل وكا 
مل ہے اوراتظر حسم صل علاط ےن ءا نانس ےک الف نونز اتان دس 
کہ کے خی مول اس کے بب خی تصرف جل لئے ثرا نيل چنا نچ ان كانتا فى 
اسم فشرطه العلمية وان كانتا فى صفة فمؤنثه فعلى او انتفاء فعلانة ن جب 
صفت بی الف ٹون موتو شرط یر ےک انی موث شعلی بو یا موش فعلانة نہ مواووروجوو 
فعلی واتفاءفعلانة لبد تکوم وو نی ےل جب وجود فعلی ہو الو انا ءفعلانة 
ضرورہوگا ميان جب انا ,فعانة بو وجود فعلی ضرور کل بر جن رات نے يكبأ اکروجود 
فعلی موا نکی فرش می ےک اشا لحار ہواو رجش نک كينا ست دک انم فعلانة مووا کا قصور 
بس كرو جود فعلی وء رعا ل ا بات پرسب ملق ہی ںک ا یمن کے1 شرل ما نہہھ 
اور مت بے کال کے سب غی تصرف ن ےکی وہ مشا ہت ے الف روده کے سا گم اور 
مشامبت ف عدم وغول لیف چا بموجورمو از مشا بہت بات یں رےگی۔ 
لاخ فکا اث كلا كلفط رحمن کے انصراف وعدم انضرا ف می اتا ف ہو 
کین رات نے وجود فعل ىكش را الى انہوں نے تصرف زا بر افظ رحم نکی 
ال نا يشال ادن رات نے اتاب فع لان شر لك انہوں نے خی رتصرف 
بها سیب وجوش ريط کے ا بتاک صاحب ن دک سروفرءاة و ںکہ اذا تعار ضا فساقطا. 
لول رار کا قول جنل بل لمات بارے بل تافوان ہہ ےکان سك نظاو 


امس می 5 15 اس نمست‪ 218 58 


55555 535555555555 55556535555536 رر رپ 63 56869 93و . 
اعثال ىكيفي تکود اما جا سے او راکوت کے مشا بقار دیا جاے ؛ چنا م تے ایس کے 
اقا عطشان » مسکرا نکود یگ اک و ویر تصرف ہوک رمعم ہیں ان کے مشا ينا سن 
ہو ےر حسم گرگ فی تصرف پڑ ناج ہے ات رحمن يتصرف تین باتفا 
فعلانة بل بیج مشا ہت اهامای وج سے خیر تصرف بڑھاگیا_ 


سيل( 6):سوانما خص التسمیةالخ: يبال ے الحمد تك ایل سوا لکاجواب ے۔ 
وال ی كا ناراف وليه كان ورور حسمن ررس نین 
اھا بک ہیا ے؟ ۱ 

جوامب :یسم الله بی باءاستوان“ 1 نقصوراستند اھ ار یناور یلا کہ 
ج بکک اس ذا تکی استعا شا ل ت ولو لكام ورا جو ی بال ہوسا اور شجورضابط سبكم 
جب سی شقن ركم كايا جا ےت راشقا علت ہوتا ہے ء یہا بھی دی ضا ہیپور کے تحت 
ای اسم کا اتا بک گیا ے جك استلة کے عات ہنیس اوراستخالة اس ات ےطلب 
کاس جوا دنار وصخا رمک لی ہوءاور یی علت ع اورا مهال يرال لفظر حمن 
و رحيم تال ے انلتق بکیا لیات - ۱ 

تم بعد لله بحث البسمله 


OBESE مہہ‎ 


ا ري كركف الط اوي 


ات "ما" ارف یا ی 20120747 رر ات ا ای ھک نف ا 

۱ المد لله | 
۲ تی هو الشناء على الْجَمِيْل الاختباری من بَعْمَة از غیر ها » | 
ہے۔۔ و سا بن a n‏ بت بابي ب جسن سن نت e‏ ںو رس سس سس ٹر | 
اھر افعال جیلہ افقتیادے بے زان سےتحری فک ے خوام تحرف لت کے مقابلہ بل ہو یا تہ ہو | 
4 سس ...2727000 رت و رر سر سس سب ا شر 


۳ 


اوالمذخ :َه وَالقّنَاءُ عَلَى الیل مُطْلَقا تقول حمدّث دا على | 


ا اورمد رح مطلقا افعالي جيل یفن ےآ مات رَد علی علمه وکرم کہ گے یں ٍ 


1 لما ی 


| عليه وگرمه, ولا تفزل خمفته علي خنیه بل مُدخته وقیل هما | 


| اراھ لش لی ہنی لک بل( موق پ انش کل کے اور سک ددرت | 


ر تد و یں ل دی کا شا می و 
|آخوان. والشکر: مُقَابِلَةٌ البَعْمَةٍ لاس د 


ول مترارف پل - اور رات رات کے ما مآ ٦‏ سے خواه ووگرقوا لا اعتقادا ہو شا تا ے | 


کب یر کی با یک سک 

| فاد اه من قلا 0 ۳۹ دی ولسانی والط لل جا 

تست سو ند ای اه سے سل سمل نام سد ےم سس لہ پوت م سے مت مس 

٦ ۱ 1 
۱ 


Fae 


| ده دبا یں تمتو کے جنك نے می ری طرف 
سحت رور 


مرت باه میرک زبان اور مر ے لوشيره دل كا | 


۷ 


ور ر 


فهر آعم مها من وَجْهء زاخص من آخر ما کان الْحَمْدُ من شعب 


enema سپ‎ e aE FTE O ta ua etar arana o 


گرد مدر سح ان ادرا لن وج سے ۔او رحب جرک حك دك اقهام کے مقاب س نتو لك | 


الشكر اَفْیَع لِليَعمَة ء وَاَدَلَ على مَکانھَا لخفاء الاغتقاد ء وَمَا فی | 


ا ےه رھ می یدع سس بح حم جع حر سی ت ت س 


9 کت کے وجود پر زیاده نت سے رت وچ ے؛ اور 0 


سے سا کے سک سے سے ا ا ا ا ا ہشن د٥‏ ۱71۳ 


وس نومه 


ا داب ل ددر یچک lT‏ کيا سیم سح 34 7 7 ۱ 


3 151515 53 5 33 35 3 5 8: 5 3 5 5 5 18 8 


ربص اف ری 


ل سل سس وموم و سل للا BE ILI‏ ہے 


داتس موی و وک نات و ےد ند ی ی 


عَلَيْ الصَّلاة راللام :ال لخد زاس الشکر. وما شر ان | 


مہ 


سس اپ ء ین 6 فان ان سے تم ری لک کی ال سے اود لس نے اش تال ی هر e‏ 
ینز سس ی 
aT‏ ےرب رود سو 7 
یا نکیا ےی ل ےو الک فر ان نقیض الشک رتگ درن ذل I:‏ 
- (1) كك تتریف (۴) مد ک تر یف ( )شرك تر یف (م) شک کیج ویر کے درمیان 
بتک بان ہے (۵) با ن نبت ب ایک ببت بڑے اعتزائ کا بان (1) جر ور کے 
مقابلات واضراوکا زک رول تعر ف الاشیاء باضدادها ۱ 
:)رکآ ریف :ت ریف شور_هوالناء على الجمیل الاختيارى من 
نعمة اوغیرها یآ ريف ولو صف وو اليصفت جمیلہ بر عفرت شوو کے انیا رش ہوخواووہ 
تيف نت کے مقابل ہم مو ئش (البندصفت ميل تشم سيفوا فشا لص یس سے 
و یلم ز ید وا« فاگ تعدب سے ہؤ۔ بكرم زپ 

اقترا ل : آ پک ت ریہ باللا فراد سکیونک تح ريفص میں شا کا دک س کک 
سے ال ذ کر بسالخیر ادر ڈک تر لمان سای ہوا او كو شا مان میں لساا نکی تد 
سج اورت تطراات نے تو صراحد لہا نکی یرک ہے اورفرماياهو الشاء باللسان اوراشتعال 
لان سح سیآ مم ےرہ وم راذات می ںآ پک يريف عام بندو ل ىتم یآ صادق 
آل ہے بادك تھا لی کل حا لاک بای تھا کی دک تے ہیں۔ شی مد یت يأك میں 
لا احصی ثناء علیک انت كما اثنیت على نفسک 


و ون 35 5 12 15 :9 095 :0 15 35 15 15 49 02 185.49 :9 92 و 


زغ ري خرف ازارو 


و 5 و و هو وه هو 2۵( .(ف22ھ956٭58۵٭ہ2”ہ,2۵5”۶]5ھ2ھھ 2 2 
جواپ(۱) :مر ف خاض ےک یح اناف کا ریف عت بار لیف کیل ے۔ 
جواب (٢):۔‏ اکر چ ریف عام ہے فواوجھ انا ما ھ پارک ہین اس متام ل لسالن 
ےق تكلم مرا ہے نہک تكلم اور ری تا لی میں تو ج تكلم بط بی ام ےلپ اتر یف هبار 
تال يك صادق] لسع 

اعرا( 7:6۳ پ سل افتيار ىك تر گا ہے رتعري فض متا مات پرصاد قل 
آل کوک بار ی تھا یک یت ری فط رب صفات افعالی(ج وک افیا با ری سل تل )يرك بای 
ہے ائیط رح صفات ذ اي یک بان سےادرصفات ذ اع( ما مق جع بصر)پاری تخالى 
اقتا رسک وگ اکر تيار ری اسآ تاتون ہو لك اور كلوق اد ہو 
ف ہے عالاكلصفات بار تا قرم ول يز امعلوم موا كرصفات ذ ات يارى تی کے افیا رل 
كال ہیں جب ايارم كال[ تف ريف صاد سآن ماکان کیت وال > . 
جاب (1): عام سج ( تمل می اقتا ر یک تيل ہے )اور خاش ہے اور وك راص 
اراده جز کی سل دک تھا ىك صفات برع کا کر وتا ےن ارادہ مرح اع رکا وتا سب 
تل میں افقیاری قیال - 

جوا( ۳):-صفات کے افقیاری ہو ےکا مطلب ہے کا کا صد ور فال کاس مويا 
صفات اکا صرورنا ل تار ےت ہےلہذ ان کر 3 مول یگ برصفات ل افتیار ہے 
نی صا وحن )لت کل اجب 

جواب( ۳):-پاری تال یکی صفات ذاعہ یراتا ر بھی برل اخقیار ہے کے ہہ ںکیوللہ 
منت ل اغتيارق ہون ےکا مطلب ہے ےک وات الک ذا ككل ول وان کےصرورش 
تارج ال الخر ت ہو بل خودوجود بالات تیان کے صد ور کے سن کان +واورصفات ڈ اعلا ری 


3 0ھ 


جج 60 9 6 6466958859896999 


الاو كركف ايضار 


موس اد رم اركب 
اظ سےا سفات کر اتید کے موی بج اشر اک وی کے اہ ان ت ہک باکق ے 
اقترا( ۳ ): .تحرف عم ام تير ٹر وگلا پ نے تو ملام ی من 
شرس كال ؟ ۱ 

چواپ: ار کی صاحب ےج کیٹ یف يبل ہش رطس راح کا کی ےلو و ہتفر بر لمن 
کے دج ہے ورنہ یش رط تخ ریف کے الفط ےکی ہا کوک ریف میس لف شاء 
کا حاورا ء6 ی ہوتا سح كر جاور دک یھی جب ہوتا سے جب ككلم ام وگو گر 
لج یم ہوبر وا ستهزاء کےطور یر بو ةكرش ہے ڈک خی رتسب زاس قی دک تمرح 
یضرورتہیں۔ ۱ 

سل( ۳): ملیف مرح :ا لک ری ت الى ہی ین هف تکااختیاری مون ضروری 
یں كلدم چوک اختیاری ل لهذا حمدت زیدا على کرمه و علم هک ین 
حمدت زيدا علیحسنه با 3 یس ہو گا وحن انیا رتیل مدحت زیدا علی 
تا کہا جا ےگا ال لا هدو مدر میں نموم تصش لیلج 

٭٭وقیل هما اخوان: ححضرات ص ویر میں تر اد فكاقو لورت اد فک وو 
ورس ہیس (۱) ہہ ےل اقتا ر كل قرا ڑ ادق جاۓ (۴) سرح می کل انيار ىك قي رلك 
دجاس ۔ ال نا بل صورت بهل حمدت زیدا على حسن دکہاجا ےگ ای صاحب 
کے قیل کے لف ےلوہ بوتا ےک ہو ل تیف قی لكا قالعلا ہش ی ےی ركشاف 
E‏ فر هه 


قا دہ : نی ركشاف کے حا شی ری لكاعا ےک هذاقول زمعشری. همااخوان ے 


55535 5353535559555555 55 2 


زغ اوي نک نف اهاري 


وه مو و و هه 3وہ و و و و 8:8 و جا 15ج :0 و و و و دوجو ود موم و وه 24ک 3 ۳ ٠.‏ 


اوت متنوى مراد لین ع کی سکیونگ علامہ را شش بی ارتم کےقول ے اغتقاق مرا 5 
ہیں۔اغتقاقی دوم ہوتا ےی و لک مطلب ىہ مو ےر شت کوش ہے 
مشت كر ےکا رت تلایا ہا سے اضرب کو صرب ے اس طررح نکیا پاتا ے اور 
بت زع یکا مطلب یرت ےک فقا کدی جا ےک فلاں لف فلا ہے تان 2ه 
اهتنا لا ا جاسة رهگ تپ( تاذ( )اعت قکیر(۳) ۱ 
تاق کر ۱ 

(ا )اش ینا ی رات مانن وتن مدا میس تنا سب فى مق باو مکی ایک 
مو( ی روف اصلے ایک مول )اور ر تیب ی ایل وشلا ضر ب وشت نکیا ضرب علفظ 
بھی ایک کم کے ہیں۔ اور تیب کی ایک سے - 

(۴) ایشا كير اس ےکچ ہی لک اقا ای کر کے وین تیب تید بی برقع 
کیا جا تا ےکہ جب تن ے جذب سے ها لاش راک نان ی بكفووائل- 

( ۳ )اتتا ق اکیر:۔ اک ہی نک اش راک اک الفاط یش ہوم تر تیب ایک ہواورنہ دی 
ماده أيك بولا کہا جا تا کم فلز تن ے فلج سے ۔اوعلام چارالڈزئر کج وشما 
اخسوان کہا ےاس اخ ۃ سے اخوة مح وی مرا یں با اخوةاهتقا ن مراد کران دونوں شش 
اتکی كدر وج دوفول می ایک اد الفا اموجود ہی نت تیب تید بی 
ےکم رمال ہااخوان ےول تر اد فک نا وان - ۱ 
ممل( ۳ )رکا ر :مر فعل ینبی عن تعظیم المنعم لکونه منعما سواء 


کان کان باللسان او باالارکان او الجدان اورا تم مرس وخ شا کشم یکا 


نکم لَعمَاء بلالا اس سس 


ننننننيشنن ا نينن ا انييننا 


ا غر ري ركفي نيضار 


ب000 0:70 10:2-0: و 2 .2 رج جار 2ئ ا و کا کو SET‏ 
فا ودا یں ھتوں سے کے نے میرک طرف سے مین جز لكا لمر ے ا 
مروف ہیں اورمی ری لا نآ کک شرام می شقول اورقا بكو ررر اے۔ ٠‏ 

توا ی شاع ر کےیشعم ریس انعام کے متا سی ترب ف کی ےکی موردعامر اے 
۱ خواولسان ہو اا رکان مول بقلب ۱ 
اف :سرد و( )تراغو )٣(‏ شک راصطلا ی . 
شکرلفو تتريف رکز ری ےھو فعل ينبى عن تعظیم المنعم ان برش راصطلا یکی 
تحرف يع صرف اعد جميع ما انعم الله به الى ما خلق لاجل ”کہ بنا ےکا من 
مات بار یکوخر کرد بای عطر فک جس کے ے بار ی تال نے اگ مع کی ہو ۔ کے بارى 
تال نے پم پاک لك بد اكيا تاك عبادت پاریی مل مصرورف ر ہیں ای طررع زبا كد پر اکا 
لصفت پا ری عرو ف ر ہے اورقل بكو پیداکیا اک حرشت الى سے (۹۴۴)اور کرای 
سے الى نہ ہو تو کر اصطلاى شام اج مان لان » ارکان و جنا نک ا گی ور پر یک 
وت تار تا مصروف ہو ہاو شک رلٹوی تمرف لان ےکی تق وکا 
غلا ر ق کا ڈگ اکرش ر ا صطلاى میس لانن ءاركالن »جنا ویر« ال کے اج اء ہیں اورشگرافوی 
كل ہےاو رشن چ ری اسان اركان جتان ا یک ج نات میں اورضائہل ے انصفاء الجز ے 
انتفاء الكل ہوتا انان انتفاء الج زی سےا ظھا ءال ی نہیں وتات شک را صطل ای کے لئے 
لول اج اک ع ہوا ضرورى اور شک رلقوی کے لئے 7 ایک نردکا وج كال ے۔ 
ای صاحب نے جنگ ہیا نکیا ےو شک رلخوی سے اورااس پرقر یآ عنمتو ں کا بیا نے 
او رشع میں تسش رک ذکر ے دتیانوی ہے جب تانق صاح بکی مرا زور ےکر 
اوی نے کلام قاضی قو لا و عملا یش تاد لکن بذ ىك يبال دالس او ہے اور یا 
تیم لیات لے کہا فى قوله الكلمة اسم و فعل و حر ف کم 


رارق فک ركف نيضارق CD‏ 
و و و رر رز رر رز ٹن نٹ نر تل یں یدن تیب 
قرو رطف مرخ بو اور بيبا ایال الى الا جز نہ وگی ۔ شا ع رک شح جن کنا بھی اشبات 
ترغرى کے لئے ےک بوک ج چ یقرت کے مقاب لوا نھ یکی جز مشا رافوی سے ہی 
تہ ركياجاتا ےلہذایہا نت افادتکم ار میس یرک ولما یکا وکر بطو رج اما بلقت کے 
لبذ اسراپ 3 

فهو اعم منهما من وجه و اخص من وجه : ال عارت يتدوم 
كس اتج د تک بیان تغداود مرح مل نس تکو یا نم کیا کیرک ان لنت دای 
ييل تت ريف کے لاد ےکم وخ ملق تر ارف حاط سے سادا ابش کی 
روطو اومرح سا تست میا نگیا- ۱ ۱ 

رك حرو رح کے سه تف سرت :جو پرح تلق لاو شار سے عام بیان 
مورد سواط سے خاض می ں نو ان سل درسيان نسي هوم وتصو ان و کی مول -وضاج تلع 
ده اج اور ماده اض رات یکو زک کیا جاجا سے جلا اہ دہ ابت ى :شا صرف پا لمران ہواورمقابلہ 
یق تیگ ہو ص وید حبھی سے او شمکرجھی ہے۔ 

٣‏ مادوافتزاتی (۱):شاءفتط لان موک مت کے متا بل لل دم حرو رح تو يارس 
٣‏ پہ ماده افتزاقی )٢(‏ :ند کے متقابلہ نبل تام وین بالا کان (اعضاء کے سا بو 
فشک ے مر ول کم ور ذيان سے مون ہے یادد کرد یش افقیاری و 
اظيا یکتم من بكو موم نس لن ور یک رہ ےگی- 

#ولما كان الحمد :يهال سس ہت کین ا روالد وار کے پان ایب وا یکا 


قاب ے۔ 


ای دپ ےک وج میں نوم وتو لسن وج ہکی یا نکیا ہے ما مد بیش شیف 


افو انا 


میس لاسي 1 فش ےالحمبد زان وی ما 
شكر اللہ من لم یحمدہ ( ہش رکاج زوا ہم ہے جس تي كال ےٹھکا دای می کی ) 
وج الفت ہے سب کہ جہاں نی وم وتصو تن وج کی ول ہے وبال دو ری مول ہیں 
)دوفو كليو ںکا آ بل می تل ہوتا ہے (۴) دوفو كليو جس ےکی ایک کے اتقام سے 
دوسرےکاانھا ڑل موت كما فى الابيض والحيوان حمل احدهما على الآخر ولا 
ینتفی احدهما بانتفاء الاخر اور یل کہ کے تو لک ج اول سے لوم ہو اکچ زو 
ام اورشكركل > اورقا ون بيس ككل اورا جاک بل لال وتا اردور ےج و 
ماشکر الله من لم یحمده ےععلوم بوتا رقف تدس اث نکر ہت نموم وفصونل 
من و کی دوڈوں پا کال پا ہا تمل بعد مشش یف سےمعلوم ہوتا ےک او رگشل 
ہت سادا کی ے و ہپ و سرے اتس ملق اوراقفاء ام 
سے اشاماش ہو چا ا ے۔ 

چوپ :مج ور ہیں نس موم وخصو من میک با یکر ییک حار جر وکر با 
اناج ے اتف بكر ے تخا رانا ہک ارمام سین لعل اس جوا بک بیس لطر 
کے جتان جنال شا ء بلقب بش مان شياع بالا ركان ان شن چزوں میس سے ردان 
کے اتی اداہوتا هگ يسان ادل على مکانها ای تحقق ووجود نعمت ب 
دوا جڑاء می ددسا ل بھی بوک یم هوتسن ج بک كك اسان 
ت یمان قلب دب ای طر مل بالاركان ےکی م فی نایا یس ہوکتی ج بک کک اظمار 
تيب لین نو رما ظيط یک اسان كس تخت برس ہے او رم ریا اللا کا 
ام ی ايت ج م کے بی شک طض ووی نح كوراس اک رکہاا ور اشامت ے انف شک رکا 
یر سس قت مرگرس تکوم ضر کن مب دی ے۔ 


و میس الحمد و سو ان نقیض ee‏ 20 وو 
صاحب ہے پک ہک يض ذم اورم حك ںہو اورک کی ران 
مد چگ ایک قول کے مطابق تراد ف وشا وی تھ لہاان دونو لک ای یش 
ينك یزاگر قلعت ادف تو لاضع عند تاباجا تن چوک یل 
تم ريل کے لن یس ہوا اورت ھی صاحب علا م جار اڈ زقشر ی کے تال ہیں اورق لی تر ادف 
ان کا عن تا توقای صاحب کے نز دیب ت ادف تی راز ہونا چا سے -علاوه ازيل ذكر اض داد 
ےکک بھی مھا جانا ےک مرح وه تاوف ےکیوکہ ذم صل میس رع فيض هتلق 
تبعل رد مس بچو سل قاضی صاح بکاای یک دسر تب کرک ريده 
سکف ی صاحب نزو یق لۃافٹیادەانً ےت 

گو: :شک ری یم فران إن سے تیش کول ہے؟ ویس کت کا ی ذک رتیواو رذ کا شرن 
جا بی ری ن و ےاظھار النعمة باتیان الفعل الاول على تعظیم المنعم اور 
كفرانكا تق ۷نا ےاقتصار النعمة بایان ما يفاد تعظیم المنعمان کیا ہونا تارمو 
ره - لله اه ص0 وإنقا غدل 
اوراکی ریت رامو ےکی وج ے م زر عارك ثب لله ےاوراکی امل الت نب ے چا نشب بذ اكيا > 


ھ 


نه إلى اعد على مه 
| اوراص ے رٹ ى طرف مرول ۱ اں ےا گے اگ کو اورا شبات تر رولا ات دا مدد ث ودد ے 1 
ره من المَضَادر ای تنب بافعال مُصْمَرَةٍلا نكاد تسَُُمَل معا 

ولال ار ےاور جرا اور بل یں سے سے جوافعا ل زوک وج ے وب اد ے الات 
اقعال کےسا تح ڈرکور ہوک ر شم لال ہوتے_ 


الحو 


مر خی ۹ و وا رمق ۳ ۳1 
وَثبَاتِه له دون تجدده وخدوثه 


فان دت دفر قاری o‏ 
92 15 58 جو 53 585385 3353 12:19 جج جج جا 12 35 3 ج0 2( ج2 جج 35 :1 8 و 3 جا لا 119 ا بل و 
اي مصشف:۔ اس عبارت میں الدب کی کی بكابيان ہے او رال کے تلن بو ہیں 
(۱)رفعه بالابتداء _عواصله النص بک م وجور و رکیب کا ان سع(۲) واصله 
النصب وهو من المصدر التى تنصب کک سك رکیبکاباان ے(۳)وھو من 
المصدر التی تنصب سے والتعريف فيه للجد س کک ال كيب کے تاق ایک تون و 
ضابطلہیا نگیاے- ۱ 

ر یہاں ےار ہک کیب کا بیان ہے ادرال کے نین جز نهل (۱) مو جو كيب 
کی سج( )ا لی ت کی بکڑٰی ہے(۳) اس ت کیب کے تق انون دضا کیا ے؟ 

بل فعه بالابتداء : مو جردو کی بکاذکر سكا رمف رع بترا ماو رشت ے۔ 

٭ واصسلہ النصب:. سح کیب كابيان ےک ارم ر رمعو ل لق ہے بفعل 
الناصب ۔اگل یا مر نحمد الحمد لله اول بع مر اس لے الاک ایاک 
نعبد و ایاک نستعین سا توافت نے پش کور کروی نی کے ۱ 
تام مقا مگ کے م رف بالا بترا ,کر دیاپعنوان دنر جم فعلير سے عرو لكر کے چھلرا می با دیا 
كما فى سلام علیک اصله سلمت سلاما علیک جناخي اسل یں اھر کے نصوب ہو 
ےک وج ےق را قرات وتو بھی بذعت ليان يقرا مت شاذہے۔ 

سوال :ليان پیداہوسکتا ےکآ رال مص دروا كيب ے مرو ل کر ےک کیا وہ ے؟ 
واب:۔ چون ریش ے بارا مقصردوام واستترارته پاری کا خا ہہ تک رن تھا اور ضابط_ کم 
جب جم فطلي سے جملا سيرك طرف عرو كيا جا ےل ترا رودوا مکافا دو عاص ل ہوا چاو 
كل يهال کی ووام و امقر رلقصو وق ال لے عرو کی گیا اورش رول نے فاده دوام 
اترا رکا دیا اور روم الف لام سے ع اسل ہوگا اوراگرا کو شعول' لن رما ماج نو کرم 


HERE 


HEHE 


قاری يكرك شارت 


وھ وو ل2ث ھکد 9 و ون <2 <2 <3 و 19 105 12 :8 35 15 . وه جا لا ۶ 0953 
مت فو موم کا فا ره ند از زان شل امت ال ال افو 9 بح وت 
لئے نم نے الف لم اتراق قر قراردی تی کان دوم کیا ۱ 
سوال :اتر ا ہواک ہآ پ نے جوعدو ل کی کر تصول دوام و ترا زكر 
ہے گر س یو علا مہ اقاب رج چا کاس ےک مل اس ینس جور یھو لا موضورع 
کافا ہد ا ہے دوام واستمرارکا اید بناچنان زيسد مط لق ملس توت الا تی ز یړ 
ہے نہک دوام واس رار طلا في ی برش رف هک قر یت کن مقا مکی وع سے جلا ہے 
دوام وائ ارم لبون ےمان شا ہل ہرعالہوا؟ 
واب:۔علامہ جر اس فا هکره بالا کے سا تھے سا تک يب كلها 0 
اس دوم ترا رک فاد هکل وجا کان جب ا کو جمل فعلیے سے عرو لكر کے ماس بتایا 
جا سخ فو رضنا روا م وإ ترا رکا فا ند ود تتا ے اور یہاںعرول ےل ادوام وا رارقا ات 

ہوگا۔ 
سوال(۳)ان یی سم ستل ے کہ ج ب ی جملہاسح ےک جز و جل فعلي ہو گی 06 
تچردوعدوثٹ يمول ےدوام واتمرارپرولال کی مول مثلازيد قام اور یبال امرش 
رہ باقن بھرٹین کے تت اکتا مالل ای تل ثبت یااستحق کاس رل 
علیہ موك شل سے مکل متیر دوهرو مھا جات ۓےگادوام ات ارت حاصل تہ ہوگا۔ 
RKO‏ ار ور سکن مزب نکاا شس اسان دول ثابت 
ا مستحق تال لعف رج ل نعلي یل موی - 
جواب (۴): ر ستل وق سکم ےلکن وہ جملہاسمہ کیپ گی ر ہل نعلي بوتهده وصدوث بر 
رال ب تست جب کرجا نعل رت میں صرا بو يهال امد میسو #جذوف ے 


وج وو یق وو بت جے٭ےح جج و یج 


لفاو رتف الارن 0 
جا وا :]1 5 25 19 12173 97 15 125 110 :9 :4 :17 115 وو وب و جو دوچ رق .لح .ظط جح ج ‏ جو طلز 2 ج جع 
ہز اووا مک ار ماگل ہوگااورزیسد قام ع ل شرق لفحي عبارت يل زور ے ای هون 
ددوعدوث ے۔ 

رکم ول سی تا حا اتیل گل مول 
ےن اگی أسدرت ل ا مفعو ل کی طرف مول ے۔اور ےقالون ےک ہت اورتھاتا تو 
یا نكر سن كيك اسل تل می ہوتا ے حرف تو پاک ل نيد تكو پا نکرتا یکین اور سای گر 
نہد تایا نکر ے میں ت مشاہ یٹ لک با يها نکر ے فل ای وج سےا ناوش كبا جات 
ہے تب ویا ن سیر سے لے کرش ہوا آیہاںگی ۱ رمصدردا لگ ی ۳ ث ے ادروم صرث 
2 توشوب ایل ہے ادر وول لفظ ان انبعت کے بیا نکر نے کے لے بل 
نحمد زوف لس تسل ہام المرمفعو لمعل منصوب رگ 

۱ اوهو من المصادر التی تنصب: يبال مو جود واس كيب کے بیا نکر نے کے 
ات دای کیب کے تلق ایک قافول دضائبل جیا نکر ے ہیں۔ 

الط - يض ابل عم کت کے مطا بی ےک ا لحم مم ددصورتیں مول ہیں- 

(١)یا‏ نان کے بعد فائل ومفعول میں کو کی نکیل وان بلدا سیل اورت بواسط رف 
جار يان اواسطہءاضافت اک وت ا ل مصاور کے ما ناص ب کا عذ فک ناو اجب سيان 
ای دوضسو رٹ میں قي ایا عاخلاحمدا شکرا۔ 

(۴)اور یا مصادر کے بعر فا عل یا مفعو لکا لرنموتا ے با بلا وط باب اسطہ 7۶ف جار پالواسطء 
اضافت‌خلاشکر اله صبغة اللهء سبحانکت وال ون !ان کے عائل نا ص بک عزف 
کرت ناوا جب ہوتا ےک الک ل کا ذک کن از یں ہوتا او رگ وج یس ےک جب 
عامل ہوا ےو اس می دو ہا تیا جالى ہیں ایک دم تک ایرث دوس ری ہت الى الفاعل 


او شمر ل ادر چپ صد ر ہے وأو لک مم رات 5 ےل پا ہج ےک لال گل ال یر نی ے اور 
مه هه هه 


7 


تتا رافاري و راف اناري 29 سو گا 


E‏ وکل ےکر 7 ا صا درا چغ عا 
:صب کے قا مظام ہو تے ہیں لفظا بھی او رہن کی البدتد ال وفت ہش رط ہ كي هذ فکنا 
تب ضروری ہوگاج بک مص ررش اكير کے لے ونو رع] کے بیان کے لے دج وول اگرمصدر 
نوخ کے بيان لئ وق اس وخ لک زک رکیا جانا ےلاو مکروا مکرھمء سعى لها 
سعیهاء اذا زلزلت الارض زلزالھا عا لک عزف وج اتب ہوتاج بک مص دض اکیر 
کے لئ ہوتا۔ 


اوالتغریف فيه لجنس وَمَعْنَاةُ اه :الإشَارَة إلى مَا يَعْرفٌ کل ۳ ان الحمة | الْحَمُدَ | 
۱ تیف ہس کی ےوران TT‏ 
اما هو؟ او لاستغراق » اذ NTT‏ 
| کت اضف ریق یتسم تال یه عل 
إلا َو موه بط از بر سط كما قال تغالی "ما یک من تَمة 
أ رس اهاط اوساو نا دشار ارک تال سا ETE‏ 


فمن الله وه اشغاز بانه تغالی خی ادر مرد ڏ عالم إذ کت 
| سنالاب ادا یش ال بات رف اه کشت زدیا ةله أ 
لا یَسْتحَفه الا مَنْ کان هذًا شانه وَقْرى: مد لله ییا 


عم ہی کرک کا تقال ای ذا تکو ےک میں سب صقا سوجودول ویر برس الا لیذ ها 
وبلعکس تنزئلالهما من حَيْتُ انما يمان معا مرلة كلِمَة راحدو, 
3 بے وا كولم جاره کےا کرت ہو ہے اورا کے يكل (لاممکورل کےا خعکمرتے ہے 00 ۳ 1 
بھی پڑھاگیا ياس )ان دوفو لک واعدہ سمرت یں اجار یکن ےکی وب سے کیک یلو ں اكش تما 


عع e‏ و وی سس رت سو ٹپ سي 


اغوي كركف یاون 


2180© و و و و و و و و و و و و و و و ون و وت ون و و وو و و و5 113 جو 
اي مصنفت :اس عبارت میں ققاضی صاحب الف لامش كرب ہیں اصع ریف 
_ستكروفيه اشعار بانه تعالی تک الف لا لن ے۔وفیە اشعار بانه تعالى ہے 
قرئى الحمد لله لوال ستل ايل فائدهيا نکیا۔قری الحمد لله ےرب العا ليان 
آ نک سوال مل ايل قر اعت شاذ هكابياان ے۔ 
جح کی ار پا نے شر ں ما وریہ سوفن 
ای (۴) حر - چرم نی دوم مدنا سب(۱)زانره(۳ )خر زاره کرم رای کے جار حارم 
ہوتے ہیں زان هگ چا ہیں ہیں (1 )ل زی ۶ی ۲ )ل زی خی یی () ني لا زک 
(۳) نيل ذى نیم د زاره یبھی با میں ہیں ( )کی (۲) امتنفراق (۳) عبر 
فادی(۳) بد پنی کل دم مس ان جس سے م رکآ ری فآ بكوك بترا كتابول ش 
پڑت كه ہیں۔ 

ےھت ت5 ہے؟ الک یل بر ےک امرش 
الف لام ا بھی نکیل سیف اسم فائل وا مفعول پل تن زاحدہ کے رو ں م 
گنک هک اند وتا كال الف لام کے كر شک نے ےگوگی خر ای لازم 
شآ ساود يهال کر :کر نے سےا لازم ن كال ونت ادخ الف لام کے موک 
توبن جات ےگا اور کیب میس مب دای بن ےگا حالاكله يهال مبتداء سب پچ ریز اه 
مس عبد خا د ور کل ین سل کون ہاگ رہد ڈانی یا ار بنا بل ف وکا لب پالزات 
البرك كا شو تيل ہو سک یگ بهد ناد کا مطلب + وک ہر سك تل اف رام نكا انس 
للہا ری تا ہو اور ےکا ترس ای طررج پر یک »کر افراوف سی نج پاری 
تال کے ها بست ہوں اس تک ىا لي کال جرک تلعب موگاج بک ہشن عحالد بارى - 
تال کے ے مون لبذ ا الف لام بل کا ہ اک یٹس و ءاميت مھ( کوت م انان کے افراد 


اسف جو جع جو تج جا جا جو پ2 ایا 


الا وي بک کف یضار 


ام پووونل]>|”-سوا*اسر“*_سدرشۃژنچھ۔ Eê‏ ے 
بجا نت ہیں )باك تقال کے کے غبت ہے اور یا الف لام اتر کا موک اک یع افرارص باری 
تقال لے ثا بت ون 

سوال :الف لام هراق بنا سن يرأيك ششوک الف لام كوا سخ رای با اکر پ ت کہا 
کہ ارادم با ری تھالی سک ہی یں عالاكل تردق ز مرو بر یی مول ہے۔ اس سے 
معلوم ہو اک تبرج جمد کے اف راداش تقال کے ككل ہیں؟ 

چوا پ :زیر و گرو در وک یقت میس ری تیل کی ہے کول يرك مکی صفت 
وک پا نت اور اتکی ہیں و«بئد ےکوالل تھا یک طرف سے بی فی ہیں 
ارشاديارى تال ےو ما بكم من نعمة فمن ال خواہ پا وس عون دیب له 
ہوں ملاک یآ ری ےی خر ی بکوز من د ےدک تويز نكاد ناد اس انس کے ادتقا یکی 
طرف سے و اعطا مک دایز ال سل سدقلب می پا دک تیا یک طرف ے بيدا ہو 


اے۔ 
انظر الق فی زا تام :ماسب تلم يبال من پات کے جوابا تک کر 
کرد ہا بل - 


شبہ(ا):۔قائضی صاحب نے الف ا مج یکومقد ما قوى درج بل زک رکیا اور اتترا یکوموشرا 
لد شحف می نیل سے بویا نکیا یکیاد ہے؟ 

جواب:۔ چونک ہن ف في میس قاضی صا حب علا مم شش کیک یرھک ر ے چگ علا مم شش را 
نے الف لا پش ىكومق د ا تو ی درخردیااوراستفراٹ یکومور‌خراس لے بی اندا زقس ضاحب نے 
بھی افتاركيات ‏ ۔ 

عر :الف لام کی بنان کی یڈ کی راف دم رآ ای کید عل ری ہے 


وت 2وج 7615 5 35 5 5 5 18 8 5 9 828 54 8 


ا فان نپ کرت لضاري 


رو می تر ۱۱۹۱ ۱ از ۳ 401907 
ال یکیا مت ے؟ 

جاب :الف لام کے بارے تلع ,معا 7ص ص ۷8ھ 
ہے الہ اگ ری مام یں رخا کے ل کول ینہ ندمو ياو بد خر گی ند جن ےت اس 
وقت الف موف بان صل ہوتا جاور اسف ىتم کے ريد ضرورت و 
ایا نیش مول کول الف لا م ىحقيقت واببيت رخو لك طرف اشارہکرتا >البتدالف 
امكو استتغ رق با سن سک تر ی دمعو مقا مكل ایا گی وضرورت مو ہے۔ بیہاں چوگ 
الف مایت نیلف وم یفص ہو اجس کے لے یتم فد 
مور مقا مکی ضرور نیل تھی نو الى صاحب نے دک ل كك اورامتتفراق بنانے کے 
IEE‏ و و ہہ E‏ ای کی دی زگرد 
اتف بنانے کے لے ديل ںی سکی۔ 

شرا( ۳):۔ قاضی وجوش انی المذ جب ہو نے یرل خوش ری میں زشٹ یکا قل ے 
ملا مشر کی نے الف لاج یکوقو یق ارد ےکر الف لام اراس بنا ن وضع کہا سے 
اور وج شع فک ییا نکیا ےتا شی صاحب نے ال وج فکوکیو ئيس بیا نکیا؟بھنوان ور 
مشک نے الف لا پل یکا انبا کیا رسفا کی یکی ہے اور تنل صاحب نے 
دوفو کو بیا نکیا یکیکیاو ے؟ ۱ 
جواب ی وات 009 
یا نکی جک چون نیترآ اور ہب اخ ال سكموا ف تنام افرادوصفات پر 
تھی کے لیس ہو تے بک افیا ل عباد کے مال قخودعبادہی موت ل بذ اجوص ما كلوق کے 
دس شل ہوں گے وو افزاوصفات باد تخل کے باد می کل مو سل لبذ اسان 3 
تھا بجی بنا الکن صفات بار توا کے لوس جر 


+862((9 2۷2و226( ھھووعووعووھ 


EP css: ۱ 09‏ 
ین مطول رت وخ صا 8 ے اوران 
حر تک یق اال ہے اورف ایا کک اکر چ علا شش رم لى فان ا مت ور 
تراک يروس اورت توف اتف را واش بجی ے مہب اعت را لك کی مکی رعایت 
تارمو وکر کی واستنغرافى سلوی فرق یں پل لی ينا ف مکی دی بات موا 
ےک تمام افراوصفا تك بز ات البارئ تال نکیل ارت افراوجہ کے قوت وار کے 
_ جابت ولآ گنج کات ان عباد کے لئ موكيا( اح سن 

فرد) شش ہزات البار ىقال دمو ` 

فاص کیلهک چون کی اتراق كامتق ایک مدنا ے اور اتکی اور انفاء ۱ 
اغراق سے نیب اتز الک تکار لاو میا نکر اتیل ہے بل لام 
تازا نے ایک اوروجہ ہہیا نکی گی ب رش وود کی مات ہی ںک صل تلم 
جور کی افو سان تی اوراس وت جھرے یت( مھ یٹس )مرا بعد مس 

مرول الى اد الاسمی کیا تو اص٥‏ لکی رعای تکرتے ہوے الف لا هی رگا کرابم 

امین یا گے مایت کرم رارم وط ر کال مز علي ٹیش ابیت ر اور ترما اد 

كن اوح ارفا لت بح ند جات لول فعلي ٹس اہیت تماد جر مات نو مرا سي رن 
اراشا ال رہوج و معدول ال لہا سے گل جوم رت رن 
00 علا تازاف ل خودت ديرق ےق اب پاک ت جیہ می ہگ یک الف لام نی 

ناس یں ومع اقا رتخا ہنا نے میں وکوک بی كوك تھا دی ل تی ںی اس لیے ٠‏ 
ی یکوپ مایااواسنفرائی نی اف( کلمت مس دوگ یھ 

ليقام ف رورش ہزات لپا ری تال 
الاك صل ہپ ےک اگ ٹن اف راج دورول لس ی میسن جن سم دک 


MOTE FS EERE وج 8طد عجع‎ 


الظناقاوي دفي ايضار 52 


۳7 


ابت او دوسروں کے ے وکیا جس ےئنس تفت بزات البارى تیال توك ار سراق ہنا ے 
پات بس وکوک ہی وی ھا عہارت یس وکل ویر متو ید مقا اوردلالۃ حال 
کے طور يرول ہے۔ اب نی صاحب کے دوفو لقعو لکو بیا نکرن ےکی وجرشھی دا بوک 
چک نحص ری ام اف را کا اغنتصاص بز ات البار كر اور یقصوررولو موں ے وال ہوتاتھا 
تو تن صاحب نے دوفو ںکو بیا نکی ار چرالف لا می ہیا نے می لقصو کے حصو کے علاوہ 
۴ی مھ ہم" 
تاماهتا دی 

#لاوفيه اشعار بانه تعالى: یہاں وال ستل ےا فا امیا نکر ے إل امرش ' 
سح اشبات کت مھا مر ات البارق تی کے ات چا رادرصفا كا اشبات جو جات ہے وهال 

مر لجرك تت ريف شناء على الجمیل الاختيار ی الل ے او گل افقيار ىك تی کا قاضا 

> کک ورک نالف عل انار مو نو رو) یں صر ورک ا ارگ اورقا عل بھی تا راورصرور 

اف ارتا ر یکن الفائل المت نز م س کرای ذات شس پارات هوجو بو كرو زات 

۱ درگ ہو زند مق ہوہ ص يب +واور ما لک م كرد ہر پر کے وجود کے 2 مسون | ۳ 

ہونا زورک بوتا سج لق ام ہیلک کہ مقر سس صورة فق اکر چ فا ات الزات 

الباد تقال ےکن تام صفات ار بدك شبات بھی ہوجاتاے۔ ۱ 
و فر نی الحمد لله :يهال سح صوال تیش ور ہے ای ل قرات شاد وکا ان تک 

حر تسن ایرث امرس الدال يذ ھاس ورام نام را ام 

رم الدال ولا ماک ایک لف کی کت دوسرے تالخ كردق چا -2 امن بعر 

رحرالل گی رات مطابقی وال لا مکوکسرہ دیراد دال کر ھا گی اورا رشحم کے 

ار لت ہیں مشلا دع اصل شس دعوو تابقانوان سید ڈغی ہوا را کے مات لکوموافقت باء 


اغ ري برف یراز هاري 


جج 20-8 و 6 992:286 -29٤92٤9-٭2”٭<2٭وجد‏ و و و ووو و 

یج کسر وديا اوذعی ہوا كس ےتا جکر کے دا لک" U‏ 

اکر ای :- بيقر اوت یں س كوك ایک تر فک مرک ودوس هرک کت کے 
۱ جا کنا كلا مرب می سال دا میس 7 ےکن طون ات سکم E‏ 

حکمتکودوس ےک کےتر فک لت هنا كايا .ليجب لق اور ريط تین 

ان ایک مرکم تکر هچ دوسرک یکس رہ ےتا کیوں ؟ ۱ 
۱ یواب:.آ پ ننس تاج ولیم رل بالق اشکال ناس يلبق لمر نز لكل واحده 

سک لوگ بردوفوں کے پیش اكت ى زک کے جاتے ہیں جراجدام رار دش سک جاتے۔ 


ان شرت اتا لك ويح اليا ۶ ۱ 

۱ رب الْغائمٔرنبے۔<ر_ ۱ 
الوب فى الاضل مَصْدَ مر معد بعفنی ار وهی تبیغ ای إلى کماله شب 
۱ و تج اور یت لك ںگیکواس ال فآ ہش .یھ 
فَسَيئا » نم وْصِف به لِلْمْبَالَمَةِ لصوم والعذل وقیل هو نع من رنه یره 
را كصلخت ال رتا ی کی شت ہناد گیا ےجنس طط رح صوم اوعد تما ہوتا ہے وراک تن ےکہا 


کررب‌صزهفت_ب > رب یره َو رب سے ماخوذ سے 


فهو رب » کشولک نم ینم نم تم هی به المالک نابحم مَا 
تا کالم نم ھون ررب ما لكان دک وه كلوكم جزل نذا طت اور | 


,0-0 0 
تر بی تکرتا ہے اورلفظاد بك اطل تصرف اضافت ہوتاے‌جی اک ار تنا یکافر مان ے ۱ 


ازجع إلى ربک اے قا سدااے ر بک طرف دام چا۔ 


سیم وسر سر ا 2 

اع را اض مصنف: :سرب العالمین ےالرحمن الرحی مک ق کی صاحب سول 
مسائل بیان کے میں ان ٹش سے و العالم اسم لما یعلم بيك چا رمسا لکوبیانکررے 
یں کیل صب زب ے۔ 

(1)الرب فى الاصل بمعنی التربية کات یل ر بک یوی ن کیان ے۔ 


(۲)وهی تبلیغ الشی تفیل ہو کد افو یك لقن اوراس کے یل میس ایک سوال ۱ 


مق رکا جواب چاو ربگروقیل هو نعت ےٹم سم یک یئن کے( ٣‏ )ئم ۱ 


سمی ےولا بطل وکن تمل رار یک تھ نكابيان ے۔( ٣‏ )رد E‏ 
والعالم اسم لما تک استعال لفظارب کے شراک و رءكابيان سه- . 


تقر : مل( )۔الر ب فى الاصل کاتسر بک خو شین یا نر نے ہیں ۱ 


کراب نص ددج از ياب لصر صر ۔ وب یسب با ہت می تک ناد یط مج پر 
تارا حار ھا سکن باب مت رارف ہیں(١)مضاع‏ فلا کا جردربا بابه نصر 
(۳) یفیز ہا ا ل رسب یریب تربيبا () :لص يلعي نیہ ربى يربى تربیة۔ 
ان یو نک ہےتر بيب تکرنااوراصل میں طلست بب ےکم رار ف سور ہیں يوب 
كي ۓ یں کیرک جو کا باب هدر صل مضاع فلا ٹی کی باب قرع ری ماس 
کوصرف تست عتبد لا کے تسس بية او رای تالک سکعرب می تی کہ 
بال دوجس مع ہو ںآ دوس ےتا كتف ملت سے ترب لكر قآ ن یه لب 
وقد خاب من دشھا اسل ٹس دس سس تا ,تال مل يبتو ل باب ایک تل ہیں ا نک 
مت ہوا ہے ایک گی وا سک استعداد کے موا أن 1 متا کما ل کک ياتا اور پر ل 
غات شس ٢و‏ یٹس زات می تب بی لآ لہ ال تہ یت سے پیل دشرم يب 
گا ت بی تک یب واکہ يبلس ا ادبو بعد شل بقا گی ہوہ بای تھا کور بك کیو بجی 


4 


اضف وي كركف نيضار ۱ 
رر دوه رر وود دون را رر و و و و رر رت کت 
كيار تال هوجو دی عطاءگیا اوري رکیل صفات کے ور پر با وى تی بکیا 3 
سوال :ای لغوی م ای سوال ہو اک ہی صاحب نے لفظ ر بکومصدر بنایا > عالائل. 
ر 22 ہیس لفظ رپ قت .لیم با سے اورقا ون فک ل ہوتا ےزات مضوف :اور ۰ 


مص ر رکاگل ذات وبال ہوسا > 


جاب :تاک صاحب نے جواب دي کہ يهال مصر رکاگل ذات برميالغة ے تچ كبا ماج 


ےچزید عدل با وجد جده - ۱ 

بل وقیل هو نعت: تقو یکت جک ارات نے لافطا ر باوص صف تا 
ناا سرا میں اختلاف ےم ذاحم فاق لكا یش نس ہی ںک اکل ٹیس راب تا ال فکو 
تف فک با فگردیااور یف في مط ہش کا :ایا ےک ال مل رسب برون 
نين عخین ھا ءادعا مک وہ ےر ب ہ وااو کاوز ن صفح مشه کاشپوروزن ے اور 
اخوذ ہوگا باب هرخص ست جرال کے ٣شت‏ مش ینا كل دی ساب موک یکہ باب متعری 
کرو کے شرف لاز ىك طرف لایس کے اورسخ صف کا ما خوذکرمیں کے پچ تص رکے علادہ 
دوس سے لواب شترا ول الا اواپ الا زمه 2 شم لقا نهر منص كارد شرف 
کی طرف تھوڑ ا مل تی تی صاحب نے ایی ری کرو یک تفت مھ باخوز 
یم بی الم نین هد شر فك طرف روک ر کے می مف ت مد ہکاخ کیاکی ۔ 
سوال :يبال ار طوررايك فرش را تا ےک تاک صاحب نے مصدروانے اعتا لکو 
مق باتوی درجم کیوں زک کیا ے او رسفت وا احا لکوم ضیف درجم سکیوں کیا 
ایج یاے؟ ۱ 

جاب (۱):۔اشالی ررش ال بو ےاورتصول مبالغہ ایک مده جز ے۔ 


وو ات وص وم 


اي ري ی آفي التضاري 


2 25 5 ذا 35 جلا 3 1 :8 5 لآ 12 3 53 5 5 5 5 53353535 55 53 3 955 35 6 جآ و 
داب ( ٢):۔‏ مور ینا ےکی صورت ل تاه يل روا اس تھے 
کی ورت یں باب دی سے لاز ىك طرف عرو لک تاد لك رق يؤل ہے اس لے مصدر 
وا ےا خا لكات کے درو ری زک کی او رمش شی وا ےا تا ل ضعيف در س ذگیا_ 


۲ ثم سمی به الخ : ےی مراد یک ن ےک اففار ب خواومصدرہو یا صفت شيو 
ا کا اطلاقی با کک کی ہوتا ے ہیی ہے جک جوتت م کک مدنا سے وولو کی حفاظتكى 
کٹا ے اورت یت رتا - 
٢‏ و لایطلق الخ: شراط استعال کک ہے ہہ للاخ ترب می مطانق لفظ ر بک 
اطلاق فتط ارق تعالی پر تی موتا ے اور اضاف تک جا ف را نگ بولا جانا سے يبه 
فارجع الى ربک (پ؟١)و‏ یش نے شری طود برا ستعا ھی ہک اضافت اگ نرذدی 
لقو لك طرف ہو رو تباحث ولراجمت تل مشلا رب البال »رب ام او رار زو 
لتقو لك طرف اضافت ×12 جلف يع یرالد كرات وقباحت ہے عد یٹ 
شریف يل ے لایقل اح دكم اَم رک اورَبّى اعم الح لف مارک شریعت نے 
مو کوک سے روك ديا سے اورحطرت لوس ف علیہ السلا مکی ش ربعت عل ذوى اعقو ل کی 
طرف اضاف تك تے ہو ۓ جا تھا 
۱ لفظار ب بارس ماس ۱ 
والعانم اشم لما بعتم یه لت ولقلب , غلب ید 
| اور عام نام ساس ہی کج ےکم صل وجب انم اقب عا رکا اسقعال ان چزول میس غالب موكيا |" 


الضٌانع تغالي وَهُوَ کل ما سِوَاه من الُجُواھر والغراض ء 2 


أ تمن سح صا ع (خدا) تیا کم ہواور وتام جو ارو عراض ل صالخ کے علاو هک ےا کے 


قرو فك رفير نيضار ی 


سج متسو شر 9220608 EERE‏ 
لامکایف وافجق ارف | إلى مرواب و تال على تمزه | 


۱ اور موز داجب ٠‏ لذا کی لزا ل طرف ات ہے کی و ۳ پر سے صاخ ۔ کے و 2 ب لال کے ۳ 
اقرش تفن مرت تسا مب الم سےا يكل يارج سا لکوؤکر 
کیاہے۔(ا) والعالم اسم تینوی تن (۳)لمایعلم به تغلب تک اتر ع کال 
اشوک تن( ۳)ضلب فیما يعلم به الصانع مراد کیان( )وه وکل ما سواہ 
سے فانها جک لفت ءا لم کے صدا یکابیان(۵) فانها لامکانها ےواننما جفعه ک ایک 
سوال مقدرکاجواب ے۔ 

تشن :#مسيلم(1): :یخی فقن: :الما ت سے 
اوآ کےا کی تیر حاتم ذکرکی ہے وکام کیش ےکاخ ینہ ہے۔ 

متملہ(٢):‏ می لغوی: جو_شصول کاز ر سبط الکو الم سكت ہیں اور ہراس مآ کاس 
دل ہوتا ہے شش اعم لماكت لكل کے ذر لع ال مصدرکا تصول موب نام جو 
حصول م( بر :)كاذ روا يالب جوتصو قل کا زرا وت قوی ھی اس کاعام ہوا 
كنات می سے جو ہچ بھی سے 1خ عم کےحعمول کا ذریجہ نے گی ا کو یام 
بعل به سی پو جو 
علامت سے ماخوذ ہے پیل کم سے ماخوزے۔ 

ميل( ۳):۔خلب فیما يعلم: سی مراد یکاییان س ےک اکل میں نو عا م ہراس کو 
کچ ہیں جوتصول مل یآ خ رکا ذد یہ بن لین اب الكل استعال ان انشراء بول سے جوم 
صا پا رک تھالی کے لے ذدي >- 

عسل( ۳)نوهو كل ما سواهالخ سے انظاعالم کےمصدا کیان ےق ی صاحب تن 


ولمس سس سی یبر 


الغ وي فخ دشر نيضار 


وه هه 22 ذا ها ا و 5185 ۵۵29 دوه و 19 15 و وو 95 45 و و وووو مجن 


مصاد بن بیا نکر بل گے ال تہ ہلا صدا نیارد ہے ںک ذ ات بار تال کے علاو وتام 
ارال وجوابرلفظاعا لم کے یرل مورا کا مصراق نے ہیں۔ 
سيل( 8 ):- فانها لامکانھا ےسوال مقدرکا #واب ے۔ 


04 2 2 8 HB 


سوال :۔ جب تم نے مصداق عا م اعراض و جوا ركوقراردیا تو ردا لكل الما كي نے ہیں- 
جواپ :تام رورش كن يتا الى الموث تيل اورو«موث زات داج الوجودمول ے 
وراک مشو رکا متا بکرم نك انا ایک ذات داجب الوجوو زضروری ہےکیوں 
کیک نکی روپاش مول ہیں ایک و جودکی درک خد مکی ايب ہا بكو دس کے كج 
ات عل کا درجر رک ےوہ ۋات واجب الوجوومولى اش ۔اگرووعلت م وٹ وواجب تر مولو 
رن موك يدوو رشقل بای ت2 واج بك تین ہو جا گی - 

عالق اعلع گل کج پچ خو تح اورمعررم ہے دہ دوسرے کے و ودک 
ڈر هركي ب کن ے؟ او راگ مکنا كيل عا ری موش وللوج وك نوم تو وور لسلس لك خرا لی 
لامآلل > ول مات چن ےا ووی ان وجود شل دور یی اک ون کی 
الہ ہیس گے چلا کے او سل مس کار ری علت موث کن ہو ےکی بے 
کی عل کی ط رتا ہو دورلا مآ ےک 'اوردور دس دراو ال ہیں اور جازم 
دگ قال »رگ داكن كن سجس اذ ات رن ول بت 
معلوم ہو چا کا کلت مث «کاواجپوناضرورگ سب 

و كايا کان ہون واجب الوجو دی 0“ 9 
واج ب تقال کے وجود پردال ہے کے ےکیان کیا ہی وب کہاے 

البقر.ة تدل على البعیر وآثار القدم تدل على المسير فكيف لا تدل 


السما ذات الابراج والارض ذات الجبال على وجود السمیع البصير ` 
4 58 6 ید 5535 009 


9 2 93 9 5 35 3 13 532 9 3 2 3 13 3 32 3 12-32 2 32 3 ۵ 3 جا اہ امت اس شبات 
بک ۱ 
فی کل شیٗ له آية تدل على انه واحد .لو كان فى الارض آلهة الا الله لفسدتا 
یہاں ب خضرت امام تفت رک مناظر وى تال ذکہ ہے جو ایک در سے 
وا وت مقر لوگ مناظرہ سن کے ینف ورد بر یٹھپ کی من امام صاحب وق 
مقرو تل ادرت جر ےآ کے اور لے کے تا رک دج ال ناف رما یک یی ر ےرا سے ل 
دا ہے میں داي و ںای ا سکی ازفا ر س تا رمو ی کال دیش * 
ین اپ ایک شل نے دیک اک كنار پک ڑاورخت و دک گیا ہے اوراس سے تی 
کے سے وکو وکٹر ہے ہیں روج کے اوی تيارموكره رس پا ںآ گی اوراقیر 
۱ سی چلانے وانے انی س۱ سی میس بيك ردوس رس كناد پیا 
یرک نکرد بريه نے شور اد اک لگا اپ اما مکی با کی ہی لک ہڈا وٹ بول 
راسج بعلا ار بنانے وا سل سمش كب ب نک ے؟ راخ چلانے وال سك ب کن 
ہے؟تذامام صاحب نے فر یاجب ابل کی بے وانے کے ایی ب كلق اورغیچلانے 
وال سب لکق تو اتی بذ یکا نات ٢‏ نظام بخير بنانے وانے کے كيه م نکیا ؟ اود اغیر 
چلانے والے ک ےکی پل را ے؟۔.معلوم وا کرا کا کی بنانے دالا اور چلا نے والا مو جودے 
شل يرال درل و جود بای تھا یکو ما نے کے سواکوکی چا رمت پا 
اما جب ب جواہرداع ا کنات وتا ای الذزات او مول گے اور 
ار چوک مان م وکرم و جور ں لوا نک وچوررال موك عل جودالص ا ,کول وچو شتات دال یر 
رعتاح الي رتا سے و اش یہاں دو برش امان کنات شیر ے اعیاح الى الزات 
واج ب الوجودکی طرف اور و جوم ت مشيرو وال سي وجودواجب الوجودکی طرف _عبارت 2 
تدل على وجو دہ ريد لالت وجووكنا تك سے وجودواجب لات م - 


وق 6 9 :2 0ک :1 35 145 ا :ا ذا :3 5 12 


ار بت فا ۱۸۰ . 
5583328822222228 3 388369 3863 8 22 
ك المقلای! 


1 سد بد ای حم سا سس سد دمح مدع دع سس سس س س ت س ت سی تک سیت سییر سای ا ہے سا سات بد هت تساه دع دی دع هت سس 


دک تم شاد سای سای ت نما ے دمتعم ےت 
ا 


ند تا کر وا َيل یی 


اد سد رہ مان مد سات جح سے سات فاح هس ست وه خاي س تک صاخ سس تس سس ود و ےد سس سس وی ہے ہی سے وی سیم سو همه سک هه( 


مد عونت نت بای بو سس ی ی خر ی مسآ مس کس ری 


العلوين نی لین وت امس و 


بپ۰-س ت ت ست ت سے ص کک کک ت سس ھی ست سے س 


ا ا د کک جن شف 
و وق 


ET 7 


ند سس عوسی سج مو کلم ہو دراد بتک دناد مت سی دی کے کہم مر دید مر دب وم تس نی دبس مد شوب سے لے 


أ نے ماش ا هه رم دس ۳ 


کت2 لغب على لا آو التداءِ کت 
۱ 


ارب ےہ تج 9٤‏ 9 0 


5:5 5 9 5 125 3212 5 2 5 21:1 37 215 5 2 8 


اق ري د ا ایارک 


الْمخدت ځا لت إلى ہے حال لت 


ا مس دح سم یو سد سور سی اح بد مسا سای سیگ سوه هی 


و جو جمعه ےوغلب العقلایک 0207 
ٹیس ایک سوال مقر رک جاب سے وغلب اتر و کک سال ال مد ےا می کی یک ۱ 
سوال مقدرکاجواب ہے(۸) یل وقيل سے وتناو لگ[ وال ستل ہے جس می فت لمكا 
مداق انی جیا نکیا ہے(۹وقاول سے دمر لی بک نواں سل ہے جس میں مصداق ان 
کے ايل ات را اورا سکاجواب >( )١١‏ دور ےوقیل ےوقریء رب العلمین تك 
سوال سل ےجس میں لفت عا مكاعصرا الث بيا نكيا>(١١)وقسرىء‏ رب العلمين 
سے وفيه دليل على ان الممكنا تك کفگیارہواں سل عسل ق راء ت شاذ ہکا کر سے 
(۱۳)وفیه دليل على ان الممكنا ت ے الرحمن الر حي کک پا روا ستل عسل 
ل ای یی کلام کے مستلہی مت لوفلا اورا منت واجماعت ےاخلا فكدييا نكيا>- 
تر :سل (1):۔وانما جمعه ے ایک ہوا ل مقر رکا جاب سے ليلل اتسوا 
ایک فامدہعلا حظفرمائے۔ ۱ 

ڈادہ:۔افظاعالمین ها مرکا مل ف مايعلم به الصانع ہے پیل 
عال کے درج یل ہے ال کے یچ #بت سے اجنال ہیں نباتات تیوانات وف ره ری راجناس 
بہت سے انوا سلطا بانات کے كنرم» چو نے ویر وول ل را انوا 
کے بہت سے افراد - إل عام رکا اطلا سجن ری ہوتا ہے او رای تن ی ہوتا 
اما فاگ و قرو مگ رکی عاجش رک کے ے مون ے ال ۓےکہا جاتا سے 
کلفاعا مکی و فد رش رک تن الاجنا ل مسايعلم به الصانع کے لے هال شع 


1 بھی > 1 55 35 5 2 8522ھ 


الاو ي = 


مهمه وه م ا ا ا 66 60 66 68 2 ہے ا 
للقر رامش ز ک ہو ےکا ہے لک ےکا کا یکا اطلا قی افر اد کش ہکا کول افر ادا کا موضورع 
لین بل موضورع لآ نر رش رک ٹین الا جنای‌سا يعدم به الصانع ےالہت جبلفظ 
'. عا مر الف وزامامتنفراقی داش لكر کے ا سکومحرف بڑھا جا نو اس وت تن ا تفر اتی کی 
ابیت کے ہو سے ا سکیا اطلا تا ما اد نی موتا ے۔ 
اس فا دہ کے تيت کے بعراب سوا ل بے 
ات ل :ساس مقام یں رب العلمین یاس ضرور تی لی بن رب 
العالم کی تصوروامل :۰ : تواء يكيل جامقصود اه رکشت بار تھا ے اور 
کال هركت ال میس س كدقناماجنال کے اف راوکود ہو یت با ری تفای بیس داش کیا جاے 
جن شصوررب العالم بھی اکل موسلا سے با الا اجناال توعد موا 
اف لم ار نیقی یر بھی 
*قصوری| صل وان 
جواب:۔قاضیصاحب نے وانھا جمعه سح جاب ديا ےک راس تم شی شرولا نے 
ےم قصود سل ہوسکتا تھا لان الف لام مکی ا من کے لے ہنع تی نہیں سک اتراق 
انا کی ماقرا افر اوککی مو بک الف لام مکی نت ی عطاق افرا سك لئے 
و سوراف عا لمك طلا قی جن سط رع وع اجناس بوتا ہے ای طرش واحد ی مون ٠‏ 
رتا ہے ٹلا عا افلا کار ب العالم سے پیش وکنا تی اک ا يدها لم سے ای کل مرادمواور 
الف لام ال ایس کے اف رادکا انف را کرد پاہواورائ کن سکرا ل سکن ھا ےب کا 
یدرس تلق زر ہی اتراق اجناس کے لئے ماجنا کافاندہ 
یهت حالسلل ہوگا اور ماجنا کی کے نام اف را دک اف اق الف لام سے اسل ہو 
ہا کول جواب یہو اک یف لا ےکی وجب ےک شی ريا الف لم سے امغر 


8 5 5 8:15 DR EDD 3 83 5 BRS 


ارق ري نف لش ارت 22 
زس و و و ود و وود و و 2 :1 و نر و وود و و و ود و و هو شس نے کل وه 
۱ ركاف د حاصل ہو اک طهر صخ بحس اتتف اق جام پلی وم بصي عا ل ہوجاۓ 
مل( > )و غلب العقلاء: سوال مركا جاب - 
سوال :۔اس متام رب العالمین عل العال می نتم دا کا یف ے ادر مک رسا لم 
کا یف تیا رک نے کے لے جوا پھ شرا فط ہیں ان میس سے مہا کوک لسع كسام 
کا صیغکیوں ذكركيا؟ 
.ماش ادلی ہے ےک وو یخم لذوى العقول ہو يإ ووصفتقتص يذوى 
اعقو ل جواور ان عا مک جما يعلم به الصانع» بدا ملزوى اقول ےاوردی 
مغر ت ڈص بزوى التقول هيرك سایعلم به الصانع لطر مفت انساخو لك ہے ای 
رم میا جات وتیدا نا تیذا ہکا مکاصی درس ت نیل ۔ 
واپ:-قاش‌صا حبذ وغلب العقلاء سے جاب ر کر چ مایعلم به الصائ عم 
یں لیکن صف ت نو ے پل اکر غت کم بزوی احقول نب صطت متیر ووی العقول 
3 طررع مایعلم به الصانع نات دنا جات بلق ای ط ر انساوں میس 
بھی سے اور جوف ت تتا فی وى العقول ہواس می لكك تغليب عقا مکی رای كر ے ہو ے 
وی علا م داسف توا ييل نكا اجا ءكيا جا تا سے نو یہا بھی عق وغل ر دسي ہو ے تع زک ام 
اسن ہیں اوداك مثا ل رآن يدل جر أيتهم لی «ساجدين يهال چون فرت ۰ 
مود فى ذوى العقول چاو عیفر درا ملا ے چا ستاروں يراطلا ق مور > 


مہ ۸):۔ وقيل اسم وضع ےآ وال سل جل شل افظاعال مکامصدا ت ھان یان 
کیا ےش رات ےکی اک عسال پک را ذو یام ںاور وواک این مت جن 
دالس ہیں اور اس یشیرق رآ یدش ے لیکون للعلمين نذيراء یکم ہپ نز رنت رن 


'۔ موسو عمد هو موجهو موده م مع 


این بت رجا وي 


۱۳۳۰ رر رو اقا‎ SS 
ولس کے لے تھے اود لكل چگ ووی اعم یس سے ہیں اس لك نوی عالم می دا کرو گیا‎ 
» ميل (9):_وتساوله لغیرهم الخ وال لهال دیو سرا(‎ 
ایک اکتا اورا کا جاب ے۔‎ 

ا تر لاسام اه يست پا رک تھا یکااورا ہار تم کی صصورت میں بی ہوسا 
ےہ کل مایعلم به الصائعداٹل جو و ئ 
تہارک ے۔ 

#واب :7ت صاحب نے وتناو لھ سےا كاجواب دی کر را 
فان ولاك ہی ہیں کان دوسرى اشياء ان می مھا ول لیکو جب ز وات نی 
7 رال ہیں ذ دوس کی اشیاء دذا لمث التزا ھی کے بات مہا وال ہو جاگ 
اما ےجا ء السلطان ای ےلز وما مجيئة جندی ویر هوم مول ے 
عبارت می لک تکی ہنا رض سلطا نكا زک کیا جا تا ے۔ 

سل( *1):-وقيسل عنی بهت وال سيل ےجس میس لفناعالم كامصراق ٹا لٹ یا نکیا 
ترات ےکہا کہ عسالسم سم رادفتظا اسان میں اوہ موو ےک راےانسان 
اباد تال نے ریت یتک لهذ شرا جوقل_اجكادتكليفي .سطع كر مكف 
فتظاناس ہو سے ہیں اس لے عال مک صدا ناس ی ہو گے اور ہا طلاں قر ن پاک يل ہے 
. اتاتون الذ کر ان من العالمین بییہاں عالمی نک مصداش فتطا نال ايك یں ہیں- 

اک اقل :رآ ن یرت کامیذ استعال/ کے رب العلمین كول بذ هاكياج بک 
يج کےافرا کے اتراق کے لے رب العالم یفیک 

واب :قم صاحب نے الک واب دیا کل نالک دیف سل الم یت 


24282292 88886886889822 


جن ۹ ۱ 


اغا ري يركف ضاي 


وه وف و ع۵ و و و و و ووو مج و هو هو هه 90 ذا ۵ 52 226ئ5 65 55 و 
ركنا کی عا )کی مکی برجي رکا اشر فردانسان عل پایا جا تا ہے اش لئ ا لکوت خی مہا ان 
ہے ہت چک مر دعا مکی حيثييت رکتا تھا او راشا ری اس لئ جع ککاصیۃہاستعا لکیاگیا۔ 
فاده (0):- کر کي باس انا نكاجرفرد عام صخر سب ول ما 2 تیان 
تکوم الاسلا ما ری گر طییب صاحب مرن لہالھالی افیف فل ہہ رز میس قوب 
وشاحت سے میا نگیا سعد يشش ريف می آ یا ہے دت اکی رجز عا غر ( ]نی انان )نل 
موجودہےاورق رآ ن يأك سگ ےہ وفى الارض ايات للموقنین ٥وفی‏ انفسکم 
افلا تبصرو ن ی جآ پات ارش ٹیل مو جود میں الچ تا مآ یا تکازن انان گی ے۔ 
انا نفد ترچ او کور عام کی سے ے مغل انا ن کا ینہ زین 
کے سے او رآ ی بجخزلہستاروں کے ہیں اورمسامات اناف سے جو پی ےکا سے وہ يمنزلم 
آ سال نکی ہاش کے ہے او رای طررح1 نسو بارش کے مشاہ ہیں۔اورانمان کے بال »درشتو ںکی 
نشل ہیں اور خائ کرس کے بال جل کے ماب ہیں ۔ تيج مال مکی رم جل عل وس نو 
ہو تے ول اک رح سے سر کے پالول دل جاور ہو تے ہیں تك جوجیں۔اور انان کے بدن 
عل جورکیس موب دہ 20 مرول او درول ط رع ہیں ۔ ای ررح می گآ نے 
سے بدن می زازرلا آ جا جا ے بي علج رتل زار ہآ ہے اور یے مر لقف 
میتی ہیں اور یکر یاں ہیں اہی ہی انمان شل تنكول یرک ريتك هو سن ےکی ہے٠‏ 
كل ول ےکی ,كول سو نکی یرای امكنم نمل تاك يكرا کار نک 
یت كيل اشتعال نے دات ہناد یے مره ناک یر کر AT‏ 
سے ال ککردیا جا ے فاسد مادو لگ ول دبراز سے بای رکال دبا اما ہے اور مادہ سے ون 
بيد اكد کے بدن کے ہہ روز کے مناسب حص تک باد يا جا جا ےت که ناشن اورم رکے پالوں 
ک بھی ا کا هنا سب حص بنا ہے ۔ ای طررح انا نکی بأيال زد پاژول کے میں اور 


522 وق 289 6 15 35 828 


اغلوي داشر راناي 


A 7-777‏ 
یسے بيعل اد ہیں اورسوداغ ہیں الى طررح بدن انا م اور ناک روز ۱ 
ادس کے ہیں اودع می الف نگ پا ہے ہی بدن می ون نم شاب 
لف رٹک کے يال ہیں اک طرع ب لمكي رن ایک بادشاہ ہوا ہے اور باقی مایا میں 
اه بدن انا ایک بادشاهدل ہے اود باقی اعضاءنز ل رعايا کے ہی ںک ول شس جوخیال 
پا ہوا سے اک ب باق اعضا لك تے ہیں ۔ جب انان عالھ یر ہے اور عا یر مشا بہ 
ہے ار تال نے بیس ما کک ل لور اتا طرراعا 2 مر بھی دلب 
ایاوفی انفسکم افلا تبصرون 
ف ده( ۳):- نی صاحب نے عا لم صدا او لاقو ی درج رش کیا اور بای دراو قيل 
( صخت رکٹ ) کے ات ور ضعف بل كياا ل یکیا دج ے؟ صدا بل ض یکی 
چندوجوہ ہیں (۱) مصداق خا لى مم تاول یف رزوی العا مگیلی وج اتک ام رات الترای کشت 
درا اول میس تیر وى ا مکی دا لمت میا او رت موضورع لہ کےطور پل ہیں 
ب ( )ال یں ضراق ارت کر ذوى ام ی مام نيل اک چر بويت سك 
تت واف کر رم مک ما 7س تض بال سے اور 
مصداق اول میں رشا ضمي كوش ہے -(۳) مصراق عام پ نے زوی اعم مکو ينا 
2 اک عا ما اللا م ) مرا عم( جمسرللام) او يناي ھا لان ون فا( أبن ) 
ا آل کے لے تا درم لك انون س ےک وہ ین اف وق بو بك قالب 
تلن القاب (انسان )اتقو ب (ا ينث ) مدنا سذ يبا ل بھی ام ین الوم والمعلوم ہوا 
چا ہن تال 111111111 

الل ہا آ سمت رآ ن سے استند لا لق ايك ہوتا ہے مصداق اورايك ہوتا تن مرادی 
للعلمین نیا میں مرادن لامک صر زعام کل ما یعلم به الصانع. 


15 © 9 3 5 15 55 86828 55 5 55 8 


اغ وي نک نف الاي 


و و وو و 28222۵2۵۵۵۵ ۵5ثو22(2و58228”22۹7ھ2ھ دود وه و هو 
وجو عزف مصدا تفہ ر(۳):۔ يكيل برض ف ظاہر ےا فطاع الم عامجا یک 
مصراق فیط نا کو بنايا جاۓ تر نیس ہو ہے گی بوک کال اظمارعبادت کے متا >- 
همست ال عل س کہا ے انان ! تمل طرں جیرکی ‏ بت ذات بار یکی ر ف سے سے 
اک رع تيرق نک یکاباق د ہناگی بويت بارى شس وال E‏ 
مول اورنتقصووفتي انا ناف بناج 
(۴) اس صداق کے لاط سے رب العلمين كسيف تع س و لكل يذل ہے الوه 
تاد ل عدبي کی رو سے تق ےکن بہرحال مرو لا مکہنا ایک ناو بی بات ہے جيل 
صدا اول اس اويل سح خا ہے بک تعرواجنالل وجرے عا ن ع كاصيخ ااي ات 
اور پکااسترلا ل وو الٹاہمارے کے فی كول من العلمين مل من 
يم ہے جس نے عا ین عام سح فت ذک را يني سكل سد العأ نك مصداق عام 
بی سے نہک خائں۔ 
مسي لت ر(١١)وقرى‏ رب العالمین 0907" ات شاذ كا ڈکرفرماتے ہیں شور 
تقر ت نو بك یک رب السعدمي تور رك برل يناي جاے لفظ ال سے يإحت_قراءت 
شاذهي کر اتوب پڑاجائۓ اورف بك تن صورت ہیں »مرك بتاع پ کرک م 
کاذکرکیاجاۓ مد کے طور توک لکوعذ فکردیاجاتا ے جناي اصل مل ہوگااصد ح رب 
العلمین يبال فتدا يزوف ا نک رب العلمین مناز یوس وج سے توب بڑھا ۱ 
چا يخ ل مقر( نس اچ ولال تکرتا ے )کی باوب بڑھاجا ےگ اک نحمد 
رب العلمین تھا۔ 
7 رار ب العلمینکسورہورحقت ےلقظ ال اورشاہڑدے 


سس 


3 55 55 5 555 558 او :1 8 58 5 


تاو يكرك هاري 


جق جو بب و 2 15 2 21818 :8 و لال بل با .ات نا و و 15 و و و ۵ وی 


کک موصو ف وت سن ریف ور کے اط سے ادات مول جاور رب العالمین ٹل 
رب عیفرعش تک اضافت "ولگ طرف و بی اضافت فی ے اوراضا نت فت فا ره 
تن فک یں ديق تو یہاں لفط اشر ”حرق ے اورا یکی غت رب العالمین (إوبراضافت 
7 35 ۱ 

داب (1): يهال سر سے كيب می ظرورت تال مول _ 

جواب (۳): سنا کہ یہاں اضافت افق ے اور كيب يبل الل خا ص متا م بش اضافت . 
اتی بی پا وأ ريف ےد ا سے تله دس جات ےک تھا ا ینک رب واۓ 
ات پار کے اور ہے وال - 

جواب ( ۳):۔ اضانتٹفقی نا تر ہآ ریف کا ورا ل کل ديق جما لصب مشت اعم ف اگل یا 
مفعو ل کی اضافت ومو لکی طرف اوران می ز بات مال با اقا لکا ہواور يهالو ص فرت 
کا ماف ہے بس بل مال یافیا لکا ال بل دوام واسترار ے ہز اس صف تک جو 
ضاف ے> مو لک طرف مفي رتت ريف ہوگا_. 


و 


جواب (۴): رب ہرے سے میرف تان یں تاک اضات فی ہو بال لژ مصدرے 
جو ماف از افا و ریف قیال ہوگا۔ 

مسل( ۱۳):-و فیے دلیل الخ سے با رہوال متملہ ہے۔ یک ما مکا سی ے۔ اکل مل 
مخز ل وفلا سف اود الى سنت وا ا ع کا احلا ف ر باعل وف سف کے نزو یب عامت انيار 
حددوث جوا رورا سجاورا لل سنت کے ن ديك علت میج اکان ہے جج بت تلم 
اور فلا ق كنز ديك علمت اطتيار الى الزات الواج بك حدوث ےل جب کنات پیرا ہو 
ا گی نے بقن تارج الى الواجب لز رل ہی ںی يان ائل منت وا کہا عت کے نے دیب 


و شش سر 5 5 18 97 35 8 18 5 5 ۵ تا 


اعقاو بت تفایض اوق 


هو لے 4ق وع ٤ہ‏ ۵۵ع و و و وود و و و و و و و وه وه 2.2 و و و و و 8 ۷ و 
علت اتیارجع چگ اکن لہ کن جن سط رح دوت شتا الى الواجب ہے امیر با 
شس ی تاج ال الواجب »رل وا 2 كدب ما کک کو کے ہیں اور با کک سط ر بے 
موک کی اظ تکرتا ےا یط رع 2 می یک رتا ہے اور بیت بل دوفول چزبی‌ضروری ہیں 
وجو نعي ب کر ےاور بعد بقايق عط اکر ے۔ 


| انا رج مکوعلت میا نکر نے کے ے ددبارہ ذکرکیا یتیب یی ...حم 
ع مصنف:۔کررہ للتعلیل على ما سنذ کره ےیک سوال مق ر رک واب ے۔ 
:ا مل عبارت شی نہب شوا فح کے مطابق ایک سوا لک جواب ے۔ 


سوال :۔ ج بآ ب نز ری م الثرتزوذا ےاو رہم اویل ایی دنم الرحمن 
الرحیم کےالفاظگز ردك ل #روبار ها حسمن ال ر حیم کے دک رک ےکی کیا رورت 
ارفا اي نصا مت دبلا غت کے متا ے؟ 

چواپ :- یہاں ووكم ہیں م رل استتئانت پا کا اور امد بن میس اختقرائ سم اف رار 
بات البار ىكاءاورضالط ےل جب شقن میت عل مب راشتنا بواكرنا قبسم 
لله میں ای کگم ھا اس الرحمن ال ر حیم ا لاگ مکی ملت ته الور الحمد لله جس دوس ھا 
یہاں االر حمن الرحیم ا مک لت ےک رارک باکت اش احناف ہب 
لب کول د «بسم الھک وج تیال مات کک رارالفا ظکا اع را واردمو# 


اغا اوي نت یضار 


528 5335555355555553 535 555555355 تع تا 


1 
E 
3 
13 
3 


قعاص لكاي ررب وده لیر 1 له 
| ل كلكو يد اتاو کال اور تقد ب نے الف کے سا تدارا کی تا 0 ولاعملى أ 
مر اه تفاب امج میا طی یت مکی سس 


4 
1 
1 
ا 


مس محمد مسر مد یر ہو mi a‏ اا ری Larus‏ 


اط م 


لات کا نہ می دش 


ar‏ سد ید مہ تب حم سد ور دو ید دح سج یں ےسا سح مس صصح رم و و ت س س س س س 


وَلِمَا فیه من الع ظِ وَالْمَالكِ هُوَ ا رف فى الأغْيَان الْمَمُلّو ك3 
ليه من التعظیم و المالحبي هو المتصرف 


الام مت وه 


دح ا ے۔ اور بالك ا وخ 7 سا 


ای سس کت سس ملک بلفظ 


4 سا 
وقح عل مود ویک ١ EIT‏ 


| 

1 

1 

1 

۱ از بر روع 
1 

ےت 

موچ 

1 


اه 


أ اود لم الد ہے لوم الجزاء اوداك ويل سے( مقا ل شور ) ے جیہاکردکے ويا رو اورا کشم ا 
ووع وو وع 13 15 جن ودج جع جع جو جع 193 17 


قفا 0 


8 EEE 


ھچوپ سد 2 سس متسه تحت ده جو جچدد سح 


اور رش ے سا چم باق د را( نے ا نک برل ديا جیماکہانہوںۓ بدلمدي 


0 آضاف ت شم الال إلى الظرف إلى الظرّفٍ جر راء لَه مجرّی الْمَفعُوْلٍ به علی | ۱ 
ك عم 


wa rm re rf‏ یج یحم بد عع xê‏ داد KET ia‏ بجی مد a e‏ سد یبآ سد بح جو ع ہد مر بساح یہ 


نام ےی سید دع سس مم سم مت هت دج تسا سے سے مک سد سار سس سآ چس سس شس سس تس حا اص تسه دہ نوس وم وہ مم رو م سک 


ونادی اصحاب ہت كنده ہو نے وال جك و بصن ای 
نے کے رت 


سو ۰ 3و 


يوم جرا 7 : وتخهیّضص E‏ با ما نی 


2 


لح رس سا 


ا 


ODER‏ سی مركتلا 


وع مج 5 18 2 :18 13 جج مق 0م 0 م0 ۵ موب وت تا- 28ذ ےق و و 8 8 3 0 2 83 9 
شاڈہکاۂکرے(۲٢)یوم‏ الدین سے اجسراء هذه الاوصاف تک چا رسطورش لوم الدب کی 
ورین نتن دين کے معان کیان اوراضافت یم تن ے(۳)اجسراء هذه 
الا وصاف یاک تعن كك اضاقت پر ےک تہ اب اکر 
کرنے کے کات وتو لكابيان سپ رایاک نعبادے الا تک بات ے۔ 

)راڈ مام ے ویعضده مکترا+ت اول وا کا /(۲)بعضدہ تفر الباقون 
جک تراچ متواتراول ےتا رمو ےکی ولحل(٣)قرء‏ الباقون وهو المختا رک اة 
وات نا يكابيان ( ")وهو المختار ےو المالک تک خراءت اضر کے مار ہو نے کے 
دلا للا کا زر ے(۵)والمالک سے قری کک ان رور ارول کے مادواشتفا یکا میان 
سے ال طر 2 ےکی طور 7 از توا تر ہ جاع کے مار ہو ےکی وج راجح بان ہو جائۓے 
(1)وقرئهويوم الدی نت قراءة شاذ مسب كابياان ےگ جيرا عراب کے- 
تشر اضی صاح بكاط رزيس ےک ج بک قرام تمتو ات ملو کن مو يخ علوم ے 
ميلك ست یں اورقا ر یکا نا بھی بات ةرك ے ہیں اور ج ب راءة شا مو ییا نکرنا موق صیشر 
مہو یک استعا لك تے ہیں چناج (ا) تر اء 3او ل متو ات جن كوا لاشرام »سا اور قوب 
نے عاج یمالک يوم السددین باشبات الا لف يعدم الما نک بصیفہاسم کل سره 
۱ كافاوراضائه ٭یوم الدی کی طرف ,انو انملكت کی (۴) رل تارم وس اورا کے 
ق رآ ی کوک بود ےک الق رآن یفسر بعضه بعضا رآن یڑ لآ یا یوم لا تملک 
نفس لنفس شيئا والامر یومعذ لله يي قیامت کے ونیس کے لے مغ کلیی 
يل موك لهذا والامسر يسوم شذ لله يل لام تملی كك موک تو ایآ یت می پا رک تھی نے 
امت کے دن يب لصفت مالک ہکا ات اپ ذات کے ےکا ہ ےہا ا سآ یت کے مون 
کی موافق کر نے کے ے پا بھی مالک يوم الدی نکر پا ری تال کے لےصفت 


نر ید ین رر 215 رر 5و و ۱ 


قفاوت فک فیط ار 


اللي تکاانا تگیا جا ےگ - 

(۳) دوسربی راء ت منواتر وج سکوائ شلا شدي كار و ساقت سكعلاو وبال حضرات نے ها سب وہ 
سے مانب( کف الالف )وس الکاف اوراضافة موی وم السدی نکی طرف اخوذ امك ك کن 
بادشاہ۔اب تا صاحب نے فصل کیا ال کے تار مو ے٤‏ کن مق صاح بكاتفرد ١‏ 
سے۔ الى مس ريز حطرات اس کے تالف ہی کول جب جندقرا ءات متواتر ولج مول و اس 
یش سے تارك کرت تچ دينا ہنیس ہوا کیرک سب ایک در می مول ہیں پلک یی رتا 
رات ذو ہم تر یی سے نكن کے لئ اسل طط کچھ یکر تے می سک ہیک رکحت میں سورة ار 
میں مالك یوم الدين (با بات الالف ‏ پڑت میں اوردوسری رلعت ٹل ملك کرذف 
الالف پٹ ھت ہیں (۴) کن تی صاحب تفرد فيا رك کے اق راء 5 لويتاركها ےہ ا 
ال هدنل عن ۱ 

(۱) یقرت الى الین الش ليبن ( تن اک ےکک م الى یمور هی ان 
نزول ست زیاده وف ہیں ان وسپا لک یھت ہیں ااب رسول کے یت یا فت ہیں او راہ 
کےاشرات ان می مو جود ہی لهذا الك ترات الت يمول . 

(1)۳ بی تق رآ لی ان قراء کیم ید ہے ارشاد بار ی تال ے لمن الملک اليوم 
فرب لله الواحد القهار ا ںآ بیت شل پا ری تھی نے کک ابا کیا ے ای ذات کے 

لئے اورخووكوبادشاهبناي دابانگ ال لآ بی تک موافقن تےکر ے ہو ملک پڑحاجایگا۔ 

( )مالك يوم الدين ن نے ابام ارک تیا کی وکل سیک1 کر 
مان کک ی موتا ےکہجواعیا ن وک نتر فک ےنس طرب چاہےاوراعیان یا و خی رذ دی 
العقول ہو ۓ ہیں اوراكرزوى الحقو لبھی ہوں مشلا تلام با نی یی یکالہہائم ہدتے می لكان 
کی ز بان بیکار موا لات می بالكل مزفورع اقم اور تر بھی انم وک میس شرا وا سکاو 


2:93: 5:23 ۵9:55:9 


نز ري مكرك يضري 


وو وو وو و ج جج انا 15 322 1333 3 3 232 17 29 3 8:45 15 15 شی نات 


كلا نملك کےا سک ی قلومت ارکا ن ساطت بو ہے ارکان ذوى الحقو ںو 
ہیں علاوهاز یں پا انسانوں برك لومت مول ے اور وو بھی قلا ہے نإل او رك تضرف 
بھی اھر دن یکا ہوتا چا ب ایک زا تک ج کا تصرف یذ دی العقول يرداو رب تمر فك 
ادل در کا شراءاورا سد ام دالا ہواوردوسرکی وہ زا تك رك تضرف قلا ير ہواورتشرف 
ی على درک ری دالا مول یقن ابی ف الک ذات ای گی اورا لصفت اشبات میں 
زیاد يمه اظہارہوگا۔ 

(۵)والمالک ےوقر یت کڈ رای نک باد شقان اوش طور یق اء شاب کے تار ہو نے 
کی وال رابع کا يان ےسب ہے بط باک کک تق ني کیک اک کاس بوتا سے و 
المتصرف فی الاعيان المملوكة كيف شاء بووماعياان يرز وى العقو ل وی العقول 
ول الب تضرف مل كيف شساء يم بين اس می سک یی رکا این »تاد دک کی 
مگ بوتا جهو السمتصرف بالامر والنھی فی المامورين يهال تصر نکیل اور 
بالاعر وأ اورک تر کی اعلى ور پات ی لین ا سے امور من جن می ام رون یکی 
استعراراورصلاحیت توب 

باغ اتا ل :مالک صن ام نلک اخوزا مکی یت اور کک ص عشت شير 
اخوذاز کک ی با شاهاب دول لک مز فقا بجر صفح قبط رف ئل ضر بارش رف 
گی طرف روک کے کت مشہ ماخ زکیاگیا۔اوران کے ی کر نی طوز برددسرق قرادت 
تتامو ےکی دی لگ نال باق >- 

عو الا ای وب اككرال فى صفت ال كور یورخا بت کر نے کے _ك: 

يتل تاک صاحب نے دوک ترام ست متا کوفق را تو بعش شی ورن نے 

يبال دوس ری دیلو ںکا زک رکیا > 


اپ سا ویر یں 


فا کی ۱ 


و 3 0 ج3 2-0 7 2 :3 35 3 . 
(۱) ما لك ہرقب قري بک رل میس موتا ے اور کک تر وت چچا ا 
تم می لوسر ےو ئو ل الوجووموااور اکر الوجووہوااورحلُل الوجورہوح ہے دزی 
اوجودہوتا ے اور جوک الوجورمووو یف الوجوو ہوتا ے عر ہے الوجودوالی صفمت میں ز ياوه اهار 
م مول جاور شیف الوج ورک فت کے غاب تکرنے شل الها يرط اکال كال مون _ 
٠‏ )شت مالک رک نبت تق رٹ یک طرف کی ملق ےمان مل کک نس تقر طرف 
مول بأل پالنسیت الی شی خطیر(ذ شرافت )مول ےہ زا غت لک زياد هتارم لٰ- 
(٦)وقسرئ:یہاں‏ ےیسوم السدی نک؟راءتشاذہکایان يبل دوق ای ل قراءت 
متا کک کے اختبار س هکم كك کے وسطال اعرا بك تیر ب یکیساتھھ ( لک فييف الام 
( نک بین( تی تست کی بک رج ط رع کبک اضاف تنگ بی مکی طرف ای 
رع کک( تیت الام کی اضافت موك ديم ال نکی طرف اور ملک هن ون ے 
۱ موافق ےکرک تا نون ےک جوعیضہ عل لوزن تلفق اشن د ہوا لقع ل اورضعل مسب 
جا ا اتا ے کے کت فلو كتف كتف بزعناجاء/ ہوتا ےاوردوسرےحیشہ ملک اض کے _ 
وقت یوم لدي حول فی ہوگا لک ںی زاوی عل مول اور رکیب میس بل می موصوف 
جزوف ہوگا اور یبمل ہا سک صقت بے درکن میم ال لت لو مال بن یردد ال لفط 
کلک کے وسط کے اس ا بق اوت متوات اول ات اور خرى اعرا بک تيد لى 
کے ساتق ال می ترا شس ہیں 1 )لكا لالد بین( کا فوصوب )لوم الہ سول 
في 00 )م کک لوم الد بین ( كاف مرلو منون بم ول في )سالك لوم الد ی كاف مر خر 
نون لوم مضاف الي 67پ رکاف منون ہو نے کے وقت وام صو ۱ معا لوم الد بين 
مفعول فک او رکف کے م فوع خی رمنون ہونے کے وقت لوم مضاف الیہ ہوگا اور ال گی 
رکب شوب ون ہو ے وق بل الد ہگ ياعال ےکا ال سح اور ما لك فور 


HHHH 


اف اواو كرك ايضار 


وؤووہ 2۵ھ و صو‌ووو و و وت ۲۰ E:‏ 
منون یا رمنون ہو تے وق رو متا وفك اک ہو ما لك لوم الد بن ی قر اوت ام 
ره کو نےکر ری اعرا بک تد ی سے دوف الق ہیں (۱) ملک لوم الد ہم 
. الكان داضاند الى الوم مقر تر سے مبتراء جزوف موک (۴ )نک ۶ ارچ اكات 
٢‏ يكل وج اال موك 
خلا ص :کل قرا او وتیل مات ال مک ککیضصورت یں ۔چارشاذہ مال ککی 
سورت ييل ادل كك ورت مل مان ککی صورت می اعرا ب لول حك گے ین رفح 
کی صورتمنو نک کی ی او رن رمنو نک بھی او رخص يكل حالت نون ہو ےکی کی اودکسرہ 
کی حاات فلا خی رمنون ہوم ی اور ملک می بھی نزول اراب ھھے کے کار قرام خی رمنون 
وٹ ےکی عالت می پڑ ست گے بای کسی صورت مم ی مکی ت كيب وكيك رگا کی 
ووی كل با نص سب امفعول فيه ما تسب الا ضاقۃ تی ن تر ات ٹم ل نص بكسب 
امو لی اور چ راء نت کے وقت رسب الا ضاق ترد یب فراعت (۱) متواتر مالک 
(۲ )تو امک ترا ت شاذ ہی تیب( )لک بوم الہ بین ( ۳ مک لوم الد بین ( )بل لیم 
الد ن(۴) الک وم ال رین( ۵) الك لوم الد رين( )کک بوم الد ین( پمیک یو مال بن 
برای نے رز جیب اک کل کی چاق اء ست اذ ویش سے دواو ييل زک رکیا اور 
درک ور E‏ 7 
تحمل اوردوس ری دو رکآ ری کے اظ سے یں اور با دك منوان دی مو نآ خر ترات کے 
يان و من کک یآ خ رت کت کے فاط ےو وکو لك كس تقد ذک ییولیک دون کے 
اندر خراع را بک تبر یکی میا مہم وج وی - 
لے( ۳ ):۔یوم الدین ےاجراء هذه الاو صاف تک وومر اسل ہے ای کے رات 
ا اء ہیں تن اج اء تن کے معان ہلا سک باد میں بمیعہوجرتز زح مت واحد رشن اجام 


هن وج و 555 26ھ222 وت 


اقا نک تن یضار ۱ 
وج و 2۵29-96269 5 ۵ 55 5۵ 62323 ۵95 5924:6 ھت 
اضافت نالك الى يوم الد بین ہو رین اجو ہاور سا وال جز ایک و ها 
)چنا نچ لیم الد بین ہو پم الجنزاء سے دی نکم اول با کی كردي کان جاک ۲ ے 
چون ای صاحب کے نز ديك بیدا نے اس کے دواو ےل کے - 
(۱) کلام کرب مل وربور ے كماتدين تدان ای كما تفمل تجزی‌دومندا نک 
ام یی( )بزاح ب ما سكاشم رج ۱ 
وَلْمْيْقَبِوَى الْعُكوًا و دنامسم کم ادانسوا 
ال یں صاحب ماس ہے دی کا تی ج اد ی کیا سے ای سے معلوم موتا ےک رد ی کا 
583 نات 


قرش سا گرد ی نکن ج ای ےا تدين اوردانوادونو لكا تفعل وفعلو ١‏ 5 
ال ست وم وتا سک کات فتط چا کاس ؟ 

قاب ندال دنق زا ,نی ے يبا نحل لاو ع 6 لك ۱ 
سب اور یی مشا كل ورپ ك ایک ج دوم ری کی مصاحبت يبل وال ہورہی سب 
تب جز سیکا سیک شی سک یز[ ولو رم كلست سیت ہک اليا ے۔ 

سوال مقدر:- اک لوم الدين كيب بل لفن رکفت بن دبا ے او رموصوف وعشت 
تھریف ونیم رل مساوق مون ہے مالک یبال موصوف انا مرف ے اورعفت بالك 
لم الد ره گرگ ما تک اکم فائل یرش تک اضافت بوری يمتمو لکی طرف ہے 
اضافت شتی مول اور اضف فا توت ری کل دی از جوا ب ای کہہے - 
ی یمان ال میں مفعول فی ہےاورظرف ہے اعم فک اضاطت ال يلل ابل 
۱ مفعول فيك طرفت ینآ تماما اس مفعول فیک وقائم مقا مفعول پر اکر ضاف اليم نایا 


وس زا 5 سی سن ا جس 85 5 


اغا ري فرفر اناري 


وت وود و وا دا ”ا دا ۶دت ے29 0000ء ...ا 


گیا اگ رمفحول في برق اررکھا جات زا کک اضافت ا كل طرف اضافت فو ی موق بت لزنت 
ن لوم الد بن اوراب بو قم متام مفحول مو نے کے اضاقت لاى نشی ما کل ليدم الد بی 
اورا ی ط رع کاراب تال (ای اسنادشيئ الى غيرما هو له ) کے ور مالغ کیا جا ا 
سك بض اوقات مفعول زوم متام مفعول برا اکر اضافت لای نال جا سيت ضرب 
اليوم اسل يلطرب نالیم ہے کیرب الوم | 791+ الق ایل تلم 
یل كار ےہ رتل مر الف کہا جا تا ہے تقاصی ص حب نے ال کے لے ایک مھاوددہ شی کی کر 
جس میں ای تم کے مہا کاراب .ایا سار اللیۃ اٹل الدار ہا کی تس روآ ماد 
نا گر بے اسل ب سادق ن اليل تی مضعول ف لوقام مق ممفعول ب ےکر کے اضافت لای نال 
گنی ہے اسر ح انون باذ کت یہا بھی مال ککی اضاشتمفتول ير طرف کین 
اسکومفول ہی با راضافت لای ىك ساورال ميل ای طرح بہت بڑ ام لغ ے يبال ذكر 
روم ارده لازم وا لکنا ہہ سكن ألم لف ما نک وم الم ی نكا سيان اراده ما کک الا مورکلاٹیٰ 
لوم الد ناور شود سنك كنا ایغ من ار ہوا سکب کنا ہے بیس وی جع دحل 
کے متا ے يبال بماراكوق يس كد یت بار تخا ی نابت الا مورا ليم الد بن سے 
دل سكاع س کہ لوم الد بن کے جو ما لك ہیں لوال میں تام امور هقی لک ہو گے 
نس رع کول ےکفلاں ذات فان ترك ال مانہ مل ما کک ساق ا کی سرت ای 
یس يإ دہ مبالش موا كه و کہا چا فلا ذاتء تيز ».ا کک اس ز با کی ما تک سيول جو 
زات ءاش کی ما کک موك تو ایا ما نکی بطر لفن اوی ما لك لا کک الاو را لیم 
الد نکی یہت پاب ناک ما بک لوم الد بین اس می زیاددمبالغ ہے۔ 

چوا ب (۱):۔ جاب او لک تقر یی ےک اضاف نش لے دویشرٹیٹش مول ہیں الیک بكم 
یف رف ت کی اضافت >و(اورصیفرعشت ے مراد اح اگل اح مفعول اورصفت مشیم ے اور 


OD‏ 5 5 5 5 5 5 6 5 2 ها 3 ارت 


زغل اوي يركف اليضاري 


© 15 10 19 15 ے622 62 و 62۵ ھ29 ھ6 وود 9-8-8 6-9-2-2 6 6-6-9 ۵ 206 
دوسری‌شرط ب ےکر اضاقت الى امول بو نال پا مفعول رف ادا جال کپ 
ال بین میس ماف ال مول کی ں کیو تمول ے هراد ب فا ہوتا ے پا مفحول پراو رال 
الک لوم الد ن میس لوم الد ین مول کی سکیوئلہ یو ال میس مفعول فیہ ےمفعول بر لت 
کاضا شت شتی موتو يبال اضاف افش توس بل اضاضت مخنوى ہے اوراضافت مھنوی مير 
لخر یں مول لب زا صوف وصفت میں مساواۃ فى اتر نیف موك ء ال جوا بپکو ای 
صاحب نے ا لفظول سے پیا نکی کہ اضافت اعم فال الى ارف تچ رشب ہو اک تيل نو 
اضافت لای الى أمفعول ہم درق جرال کرک سے اک جواب دبا کر فول زو 
نام متام از امفعول ہے متا گیا س>- 

جوا( :سا کک اعم فاعل ہے اور ضا ےک اعم فاق لكل ال وف تکرتا ہے ج بكم 
اس میں ز ماشہ حال يا استقبال ہوہاگراس میں حال ياامتتقبال نہ ہو بل با موتو یل ہی 
می ںکرتا اوداك مول بی یس وتا کا ضاف ت میب بيها ل بھی ما لک اسف لکن رای 
کلف ےج سک مومت ایی ترا ۃ شاوی ہے نو جب اس میں ز مانہ بان یکا ہوا نو مول دمر انا 
کہ اضافت فش مد يطل يهال اضاذت منک ہے جو مغ تع ريف ہے ج کی وج سے مخت 
تم رو لیا ورست ہوا 

سوال :ان رخ رش مو اک تک پا رک پمال ول میں ہے اک کات الک کیت 
كياأكيا؟جداب على طريقة و نادی 9 الجنة سے اشی صاحب سل جواب دی اک 
قن وور ساب یکر نے کے لے تی لکو با ےق رکیا اج سمشلا فصعن من نی 
ارات اور وناو اصعب الجن نز يبا لتقن قرع لے اض مرکا ےکم رک 
تال تک ہو گے ہیں۔ 

جواب (۳): ۔ اعم فا لک اا مو لك طرف ہویب بھی اضا فت شی اس دقت مول 


5 8 5 8 3 5 226 58-4 26 ٭ و ضھ 


۱ 9۹ 1 


الما وي كركف او 


وه وسر وه وه ههه موه هو هو و 04 ۵ وه 5 ۵و 99 a8‏ 


سے ج بک اکم فا گل سے مال با ابا لكامشق مراد تواور جب ال سے دوا مورا خصوز و 
اس وقت اضافت ی یس مول کوک اس وقت و ومول مول نکیل ر بتا و اس ھی 
اک امم فائل کا مع دوام اقرا رکا ہ کہ ملك اليارى تال ی الامورکاہا فی نيم الہ نک وج 
لت راروالروام ےسج دوام واسترا رکا از اضافت فش ری یل اضافت معنوى مول اور 
اضافت حو ی مفي رشع ريف مول ہے ۔اب تاش صاح بک عبارت ل کون کات تيون 
اجوپ ے اا زمر ۱ 

اه جواب اول کے پارو یں قاصی صاحب کے ہی لرده‌جاورهی ایا سارق اللية اهل 
الدار پدوغدت ہو ہیں 

سوال(١):-؟‏ پانے محادرہ تلایا سارق الليلة اهل الدار اورا متام بل الليلة 
مفعول فيد لوقام متنا مفعول ب بنا گیا او رسا ر متعرى بی ک مفعول ہوتا ےڈ اب فرش یس ےکہ 
جب ا کا ایک فعول الليل: بمکورتھا تو دوس امفعول الل الدارکیوں زک رکیا ارال ال ر ارکومفعول 
بای اس لول یا ہتا او كر هليل لمفعول پا جا ال اراد سک ورك ريل 
روتک ںآ وهی کم کرای سے ی رالاس - 

چوا پ: #مفعول اوقا تم متا م مفعول ہہ تا رعضاف الي بنا ےکا مطل بیس موت كرا کے 
ل مضعول بک لیاط وراد کیا جا سے بک باوج ذمضعول فير کے قائم منا ممشعول پر 
مضا ف الیہ بزاے کے اکل مفول روا ارادوٹش برق اررکھاجا تا ہو سط ر رع ما نک لوم الد ین 
عل الج یال مضعول رم مقامضول ہروا ثن انمض هاف اص لمفعول ای 
کیا جا نے كسا لك الامو رکپاق الد بن فو اسطرر ا کیان سل صل مفعول بال الداركومر 
ترارركنا و ہے یلزید براں نگ ہوسکت سے كرتا صا حب سكا ادرو کے زک کر 
۱ بش ای طرف اشارہ ہوک جن ط رع میور وس ای مفعول كالح كر کے ا کو برقراررکھا 


1 935-322 5533 17 29 7: 22 3 32 35 3:3 


زان ري دش اليضاريپ 


120--7 
گیا ہے ایر ما کک بوم الد بین س ی مفعول الاو رکا اکو برق اررکھا جات ۓگا۔ 

۱ سوال(7)۳ 1 پ کے اور ہآ ۱ سارق الیل ال الدار یی سار ق ام اخ لک صخ عا بن دما 
ہے عالائلہ ام فائل کے عا کی سبك کے شرط کر چ اشیاءل( مرکو رق ٹ تب اقو مبتداء 
موصول ,موصوف ذو الال لی رف استنفههام مس این سا کی E‏ 
اور یا سار دایتعا هنکن ے؟ 

جو اب ہل ام فا ل کیو لقن پاات کی تقیقت ہی کرام فا دهم ے جوذات 
“كم دا ہوادروہ ات > تصرف با مص ر رگ وچ را یروث ہو ال سے لت رای موصوف ب 
زوالحال یا موصول ونر ہکا گیگ کیا جا تا ےتا کہا ذا تہ“ مک اد کین ا 
جرب ان متعلقات ستہ لخ کی صل ہو جا ےق كلي یکول ض در تی لبذ ايها با 
جرف ندا ہے جوا لكل الزات ہوتا ے جب زارت ان ہو کل کی رور ٹنیس ی امتا م 
یس موصو یک زوف ے ایا سا رق الليل: جب موصوف ہوا نزو كي سي اث لوجت 
ا فائل می صلاحيي تل پا گی اورمثال وتار وتاش بالكل جا ۓےگااورآپ کے 
کیم کے فد ے با لد ہیں گے۔ چاراتزاوعبارت پا ےہ ے۔ 

ستل( ۵):وقیل الدین الشربعة دینکا اف شرلعتہ اوداك ”ا تیر رآن ير 
سے ہو کے شرع لکم من الدین ماوصی بل يهال د بین ےش رلیع تی مرادے کیہ 
دور لآ بت میں سأكل جعدن مھ شرع وا اس تالک وج سے يهال ديك ےش ربج 
ھراذہوگی۔ 

(۲)وقیل الدین الطاعة ديز كانت الث طاعة جاورا سکی اتیک ےت رآ ن پر 
میس ہے ڈیکن اس نان دعا لى الہ یال ف رہن جعقرات نے مضا فح وف لكلا ہے ائی دی 


ال اور دی نکا نی طاعد مراد یا ےان دیلوں وال يبال رونوں مخنون کے یا و 
2# © 5 6 5 53۵555:55 


35 جج جج 0:72 15 135 3 جج و 28 و 2ت 12 :12 317 12 :33 10 ظا وه دج 56د گاج ےد نا 2 
شاخ کل + کم + .ما لك ہے پوس رش می ہکا يالوم طاعة؟ 

جواب:۔ بیہاں مذ ف مضاف ےی مالک ے لوم اء طاع ہکا اور ام اش یه دک هر 
شبہکہطاعۃ سے يمك جا ,و وف باه حش درست ونان شید کی زا یموق 
ج مہا ل ی درس تکس با و ا ںکاجواب ہہ ہب كمال جاور مضا فز وف تالاش کے ن 
با کک لوم جز ريد الش ريع کا لتك ی نے ش یج تكولا زم چا اورش ربج کا مكلف بنا ل ج ا 
ےد نکاما کے۔ 

فاکدك:۔قاضی صاحب نے1 خرى رون لول سے ڈگ رکیا ہےاگی ووضعف چاریں- 

)١(‏ مت اول می ت مکیخواہ تيك جو ب بر شطع موي عاص بد جراي كك جز اکا دن ہوگا اور دوسرے 
رون کیش کیو لكا سوقت ج اء طا عت اورجزا قير بالشريحد سے اور یلو تام 
يتن ہوگی عا یی اور رو ںکی راکرس ہوک یم اول مول ین نت 
(۴)او لمع میک یتم سك عذ فك رتكا بكب كرنا رت اور شرق وومخنول میں ے شر ` 
وا لے تی یں دومضماش نكا عزف مان تا ہے اوراطا عت وا لعي یش ایک مضا فکا زف 
اماي تسج عزف پر دم عذ ل7 )سب 

( 6۳ کل اولى کے لے موادرا یکچ رہ لے ہیں اور وہک رالاستعال ہے اوردوسرے دوتو لک 
ا تھا تمل يباور تمل سملت ون ن جوكثرالاستعال مواورای کے اورا تاق بول ا کو 
مل ااستمال يرز يمول ے۔ 

(۴) جوم اذ تم کل وجرا كمال حاص لکنا سے و ولتق اول بھی میس حاص ل ہوا ہے انی ال کر 
دومنوں می ئس حاصل جو يدلاول ل بھی می او دسر دوش نتب 
(۵ )تیش سے اعت رات کاجواب ےک خوابقر رت مال کک ہاور ريصيام فال مضاف و 
اقراء کل ہواو ریغ فت شب مضاف ال لوم الم بن ددلوں ش ت 


جووہ 2537 2 5 215 35 5 15 15 8 19 199 ھجت 


الغ رن وكركفين زاو ۱ ۔ 


و و © و وه و 15 15 1 05 953595 18 25 125 39 95 :9 :9 332 :ذا 2 32123 33 42-82-428 

کاش تخا صرف لام د نکیا ا ا شا یں الاک اش تھا 2ا و مکنا تکا ما تک ع لاي 

تمس موی ؟ ۱ 

تاب :۔صیغ رام فاع کی اضاقت الى لوم الد بین ہوگی 2 اس وذنت مضاف الک تی م قصور 

ہو یکیون تق امعانی یل جکراضافت کے وقت ماف ب مضا ف ال رو نگیم قصور 

وی ہے يبال ضاف اليم پم الہ نک یمم کو یا نکر نے کے لے اضافت ماک کک یکی کی 

سح اورصیذ صفت مش ری صو رت می تفرد ای تیا لقصو و کرو رک کی نا ری با دشا یھی 

نو که كما فى قوله تعالی لمن الملک يوم لله الواحدالقهار _ 
وَإِْرَاغ هده او اف غلي له تالی من کون مُوجدا E‏ 0 


مات ہہ جار ىا کنات اک ہو الما نكيلع مور جو ناور ا نكي مر فى ونم ہوم ربل معدا ام 
ربا لهم مُنعما غلیهم بالْغم کلهّا طاهرها وَبَاطِِهًا عاجلها و آجلهاء 


اف ات کے مات خواہ وه انعامات تاره ہوں باباطی فور مول با بعد میں لت والے مول | 


سنج و سس aot ma TEN‏ تسس ےھت eens‏ 


مالک زرم یرم شراب رالعقاب , للكلالة على أنه لفق ۱ 
| اوتام امو رکا ذا اورم زاء كدان یل ما کک مون بي اوصاف د لال تک تے ہی کج رک تیا أن اونا 
رو Ra‏ دور رو ُوسع E‏ وت Mf Rn‏ 
با لحم لا اعد احق به من بل لا جف على الْحَفِیقَة بر »ان 
تال زیاد موی ن عرس یقت می ہرے ےکوی کی تن میس اود توائ کے واک | 
رر ےو ور سے سے گے وم و و و 4 ۹ ر 0 و وو 
| مک رحب صف هري تاتا س کہ وصفكم کے لی علت سج اود ال لی بھی اوصا فکو کیاکی | 
الْمَفْهُوْم غالی امن لصف پیلک الضَفات لا ستامل لان 
ک روم تالف کے ب مخلوم ہو جا كر جو ان صفات حك سات تفیل دوج کا تن نہیں | 


ا ملسم 35 6 5 3 55 5 35 5 35 12 


تاو كركف اون ی 
ےک ےت O‏ اب ۱۳ 8 


یمد فطع ان ء فَيَكْوْنُ لیا علی ما بَعْدَهُ » الصف ۳ 


ات يه سح م سے سے ےد جس سر یچ سد شس یر رر سے س یع س مس سے سے 


اچ باه دہ عادت کا سخ و ۷ وہ اس بابته 7 مہا یل کے دان وصف بل 
ال بیان تَا هو اجب بلخند وهو ییاه ار ۳ 
BESE‏ ای ۱ 


تو وی چو جج 21 ےا 
والشایی والثایث ِلدلالَة على از نه مُتَفَضِلُ بذلک مُختاز فیه ۳1 


رح ہر بس ايا س 


ادوس کی لوق رک شت ا بات بردالال تک نے کے کا يرانهاماسية اتتا ر سےلبطوراصا نکرتاہے | ١‏ 


سا و و 


يَضْندَر منه لایجاب بالذات روخب عَلَيْه قم قَضِيّة ساب الاغمال ۱ 
ایی ےط ر ابو تناکا سک سے انم جیا کی صا ا ۱ 
حت یس به اد والراع یی الإحُیضاص قوت الا فيل 
أ کان انعابا تک وجہ سے ذات بارى ن مير ے اود چوتھا انتا ی مرکو غاب تکر نے کے لیے ے أ 
الشركة فيه بو جه ما ء وتضمین الوَعُدِ لِلَحَامِدِیْنَ َالَعبد لِلمَعْر ضِیْنَ 


تقل میلست ے جا سے انز ای شر تقو یں کر ( نز صف اس کی كرك ) 
کا کہا من می عازن للا بکاوعدواورد سے اع کر نے ولول کے لیے اک وکیدہوجاے۔ 


ارا ی مصنف:۔واجسراء هذه الاوصاف البرک ان اوصا ف غلا ارہ 
کے ذکرکرنے سے کا ت کا بیان ےمم معا اظ سے اس کے ناذا ہجو 
اوصا ف لات کے د وکات اوح سرے ج یل رم یش ک ےمد «ذكات د 

(1)اجراء يزه الاوصاف ے وا شا رک وم اوصا کا پل گی( ۲) وا شعارے الصف 
الا و ليك جم ور اوصا فلا دكا دوس اک( ۳)ف لوصف الا ول سے رايا کن تک جر یشم 
> علبي ہمحد وت بیان ہوگا_ 


وڈڑھموەووووو و ٭ دوؤوواوے ود ڈوو :14 119 


لظلا وي فک رآ لاو 


پیر ےڈ رپپوویویییرارا 5 
شر -(۱) وم فا ت جا کبک دک اف اللہ کے بح دان صفاتغلا كاذك ركو كياء 
قل ات لرا وما ق لاغ کے اوصاف کے معا رب الى لبن مخ قال بإرق توا 
مو لا نتب اورم ل لل نکھی میں وگ ارچ می تک مغ ای مار ليان 
شس طط رع تر یت اسل مو جور کےا ابعا تك زیادٹی سے بو سا ى طرح اضافہاصل وجود 
کے ات کی ت برب کان ہوتا ہے دوس یی فت الکن ال تیم مان دونو لول کے ملا نے 
سے فلا د تنا کر پر تال م ہیں تلا ری تتمتول کے لیا دو ےکی اور ای کے ليا 
بھی ای طرں دنا وی تال کے انا ےکی اوراخروي نھتوں کے لياط ےکی بہرحال 
بر اظ ےم ہیں تی ری عفت ما کک لوم الد کہ امور کے مالك می سٹو اب وعقاب 
کے دن شل دا بكتري ہے ۔ک فا کے بعد صفات لا کا زک کر نا دلا تکرتا گر . 
پا ری تھا یکی ذا تگزاا سی نج ارس یس لئے رک موصونی ‏ بعر اوصاف 
خلا کا ذکر ہوا اور انل میں الم رکا ذکرموجود سے اور شمپورقا فوان ےکہ جج ب کسی موصوف 
لصف برسم ایا جا ےڈ ان اوصا تک قآ ا لع مکی علمت ہواکرتا ہے ۔ بیہا ں کی 
اتا مراكم ہے اد رآ صفات ثلا کا کہ چا اتا یکا ان اوصاف دالا مون تا 
چ كيل عالت بن ےگا۔ 

كلكا خلاصہ ني :و ا كران صفات لاش 0 سے اخضاص دا خقا ل7ھ 
لزات بارى تال اکل کیا نكر انصورے 
فده :چوک يهال اوصا ف خلا نكا اختصاص بذاتالبارى ےا نی بات ےکا حخقا قم 
بھی فت بادك تا لی سكس تيمض و کرک اتماص ع متي ہوا سے اتا س معلو لکواس 
ناء رتاک صا حب نے عارت می وک كيالا اعد ان ین اس میں شمشک تھا اگر 
چ ای تياده ےکن مسلا ےک خی اون کے ےس اقا ایت موق ا کو 


555 555955 55 5 5 5 5 5 5 214 


اوي بے تھا 


((و2((۷2((”9و(2”و((جوەوإووعووجعوججوووجوعع یہ EH‏ 4 
ى صاحب نے بل لا ا ار 01۳ ا 
بھی ا بم تيل اورا ل يارت سےمعلوم ہو اہ ال تع رقلب ےتقصوراف راوشس فان ت ب 
کم میس ا قی رقل بک و كاذك ےک چوک انتما ہلل بذات الماری ہے اسلئے في رجحب 
اوصاف الا وتات وگل 

- جلاوللاشعار: سوم صفا تخس ذکرکر #_ذكاكلد ھا شرا هط رات کے تہب کے 
مطا ب نہوم خال کا اغتبارتحقرات شوا نع کے نہب همطل ہوتا ہے احناف کے نز ديك 
نو قط اتب مفهو تال کاب کل اتپا رک وء چنا نچردہ ا یط ری کب ہے پات 
عليه ومعلول سك اظ سے ابت ومعلوم مول تو فهو تالف کے طور پر یہ بات کیلک یکر یں 
ذات بی بیصفات بل ہوگی دہ رل موی شرا نے ا مہو مال فى اس تک 
ماو نطو آ یت نوي ےک ا شا ت علست نح ایک مل :الاك با ری تال اتنا ن ص رگ 
وج ست نلعا رت بل‌لیزاجوزات نجل ہوک وہ تن للع اتکی س بو جس 
سےعبادت یراش نی مول 

اشکال:۔ اس دشانن ب اشكال ن العبارت ےک اقا چ کے امات للہا ری کے وقت 
ولال تک لفظ بولا اوی تا ر بخم راث فی عیادۃ غ رااش اتتا مھ !خی رای رک نہوم الف 
کے اظ سے ثاب کیا عا لاک ی نقصودمنطو كلام ےکی ےل ہوسکتا ہے فو تالف کے 
ارتكا بكا كول فائد می کیرک جب ہے صفات عات ٹن ہی تفا عرمعلول لے اور 
ا بھی رسفا تش لد ات البارى اور یزاس اشبات معلول ( جن اقا )سك لے ان - 
صفات کے علادواورکوئی علت تی یں اور يرضاليط. سبكم جچہاں شتا علت پا معلو ل ہووپاں 
تفای سح اننا معلول ہوتا ے دلو قصووی پات تز منطوق عبارت سے بی حاصل مول 
الف جوم غك او ضرورت ی رك - 


99:99 9999999990 


۱ الغا ري پت راف یضار 


جاب مان الشوائح: ذس ایک توت دا ضور ایک ہوتا یر لول پھر بدرلولی لو 
کسی اوس مک جا سا ہے یر 7ص کن ےی دوس لاش ل جات 
اب ہے با تآ پگ ےکر انطاءعلت سے اقا موی مركي لیکن ىہ بات موس 
يلول منطوق قو بچی ےک ات سے اتات معلول جک جب بي لول قو اس سے 
دوسر عم پاد تخر وكا کال کج دواد انی در تو یں دب تلا ف موم نالف 
ےک نمو مالف عند الشوافع رو موتا ہے اور ول ےم انی کین 6 قدى مول ہے 
خلا فم ہا یک ین زج ن خی ارول سان لے ہم نے ا مکو پیا ے کے لے هوم 
ال تياس ۱ 

لاف لوصف الاول : یہاں سے برايلمفت سل کات کا ان ہے۔ 

(۱) مف رب الا لین سح اٹارہ ہوا اکہ وجب ام رل زات البارگ تيت ہار ہے وه ال 
ررح لك نام تك میحرت انان کے بی لے بيدا فر بل پم حطر 
انمان انم ےت تب ہوک ہے ج بکہ يبل انسا نکووجودوبقا عیب بو قن متم سے 
تع ہو ےکا صل الصو ل شت ایا وت تر یت ہواجب ان جیا صفا تك وج ے انان 
موی لک رسک لو انا نوم ا ےرا مخت هیهت ترس وجب 
ھا کا 

(۴)الرحمن الرحیم تلایا ای یکی 

اقا :سا مکانیات پر افحامات پاری تھالی سكسلل می من جب ہیں(۱) فلاسفركا(7) 
مز لک ( ۳ )ال سنت وا باع تکا 

(ا)فلاسغ کا خرہب ہہ س کہ پاری نا ى سے تام اندابات کا صم ور وبر الا طرار سب 
(۴)مضزل ہک نہب ہے س ےک صد ور انا گن ال ات البارى على وجہالاضطر ارتو خی ںان 


جج جع جح جع جع جا جع جح جع وت جع جح 92 2 22 7 7 جع :17 5 35 جع ج3 2 377 85 35 وت 8 پک 


اغ اوي لن یضار ۳۰۸ 
8 جج 35 35 29 10139 :026 وق( 928 4ے لے وج ات 9 ل-گ32تھھ-2ھ 2ج 9 9 149 (3) 2 جو 
واج ب رورس نات و اود زا عاصی با ری تخالى ير داجب ہے اود ير وجو بی تر یا 
اشطرار کے مشا ای ہے اور ہرد توب اوج سوایل اعمال کے سے اک يناء مر لامكا لذب 
لذات البارى ٹیس اختا فك سس ہیں ( ۳) حرا ت عون ایل سنت دا لجا ع تک نہب بے 
سکول ينام احادات واحمانا تنل وا حسان پا ری ے وگ نال تی لی تی ککی 
کی يقابك مرت بكرن واج کل .تو اب اف ار ال تیم یں اشاره موكيا تلو ہرم 
کے ارات واحرانا رک فل واحمان کےطوز بہ بل( سے ل وف سفری تر دید موی ) 
کون رد سے ہے اور رر کا می رفت القل بکا ہوتا ہے اور بارى تھالی بل غایات 
مراد ہیں وال ری نی فصل والاحران ۔ اور من اد نہیں تاش صاحب نے ال 
مشت کے سب كت اوردوصرے وون مہوں کے ابطا لك دک طرف اشار کیا ےک گر 
دوسرے دو شرب مرا لے جا می تزپاری تا ن متیر ع ابول اکر انحا ماس کا 
صر ورک وچ الاضطرار ماناجاۓ ( کا قال برالفلاسغۃ )اقا رل ات البار ىبل ر چا 
کول وط رار تاب ل ھ وق ری نیس ہوتا ای ط رح اگ رصرو الا تا مات گی وج الوجو کا 
تو ل کیا جاۓ كا قال اح ر لف ری ارات الب رل ر پیا کیو کوک یجن 
تی پر واجب ہوا واجب کے اد اکر نے سے وہ ادا كرس وال قا بل رت مو شل ار 
مقر قرضہاداکرد ےل اس پر ال تیف کیا جا ےک یکیو اس فق دوسرے سا 
کواداکیا ےہ ز ا متزلہ وفلاس کا بر ہب پل ہوااورائل سنت وا لماع کا رہب ما بت ہوااور 
اتقات عل زات البا ری ی خا بت دراب 
يستحق به الحمد شک اا نہے۔ 

() ما کک لوم الد ین اس کے وك كر ے سے قصوراختاش ےق یل جوأ صغا تگمز ری 
ہیں ان بی صصورتا و رات نرق یرد ہیت مشلا پاپ ےک کی ن كرتا ہے بابادشاہرعایا 


اغ ا وي فک اش اوي 


و وه هجو من بر رر 8 ری رب 3255 552 ہر تل مم تل 3 :097 3 
کی کرت ہے يا الى طررح انعا م و اسان دنياو كلوقك طرف ےکک ہوتے رخ ہیں تو 
تيص نرم وق کر رض نمو ہکی ریو یت رھ بادى تغل اوركالات ل امو نکی خی کی 
سس يكن ضور أو ہم شالت خی رھ اف ای صضرت ک ےک رال شل صورة فو ہپ من کت غير 
کی کیک اللييت امو رکہان ليم الد بن فتط ذات بار یکی کی وکن ےت لام کلاس 
عل اقا کے ے کی صفات ہیں اود ييصفات فقطا زات با رک ٹیل ہیں تو خا س عليه فی 
ال تضق سے نی ص معلول نفس الا مرکو بال اکن کے نبا سے بات موق پم 
مرت موا ت کیو تن شل قت میت با يك سبك کے لے مول نجس ال مرس 
تزبييتكرنااورانعام د يناو روفتاذات بار تال اکا رف سے هيز مالک الامور 
كلها فى يوم الدين يل یکی اشاره موكيا کہ چوک شس مالک الامور كلها فى يوم 
الدین مو لبذ اعاب رکو ا بکاوعد واو محري نكن ام دوسا الى وی رکا بول - 


لغ زف ری بت فلز اوق 


18 زف 82 لے جا 6 3 33 5 35 33 ودے :3 5 2ہ ےتوج جج( 


و تمع كسد ميقم ام و و 7 ۳ “ل اوم ام مر مر و 
| إن لما ذکر الق الحم ء وَوْصِفَ بصفات عظام یز با عن 
۱ پل جب اس ذا کا زک كياج کا ہے جو لال یج ہے اور ای زا تک اک شم الشان صفات كرك 


سای الا ول للم علوم معي حوب بڌلک »ى يام 
و اورا ط ب کا معلو من کے اتر تلق وکیا تو اب اس زارت بصينه خطاب زک کیا اا وزات أ 
هذًا شَائَه نخشک بِالْعِبَادَة والاستغانة ء لِيَكوْن اَل عَلَى الاخيضاص 
يشان ها نحم عبادت اورا توا وتر ےہا نو كر ہیں :ا اک ذبادہد لال کر ےاختقمائ گلپ 
وللشرقی من اسان إلى الان يقال من لیب إلى الشهُوْدٍ ء 
۱ اور کہ ول سے مشاہرہ کی طرف ترق اوراتقال من الغبيع الى شور رز باده دلال یکرے۔ 
قلعم صاز یا العففزل ناهد لیب حورا یی اول 
| اوی اک ج جز مج شک ووخیاں موئ اوج تقول فید نی اب مشاحعد واورتضورث کل کلام کے 
کلام علی ما هر مَبَادِى حال الغارفِ من ال کر والفگر وال فی 
اول کی یادا نات جر مرف اپا حعالات هلت زكر ور اور نات بار یں حا ل | 
امائ وَالنظر فی آلائه وَالاسُیدلال بصَنانعه على عظیم شانه باهر 
| ارك تون ع ور وتوا کرت اود الطد كا یر ول سے کشت کے درجات يراستدلا لچ اور کے | 


لابه ثم فی بم هو منتى آفره هو أن برض لجة الوْصْوْلٍ 
خر سلطنت يق دجب ريجلا سے یں اس چ جوسا کال ےن ولا نو ري ركس با 
وووچث ١‏ 


١‏ شاف راشاي گے 


1 ا pt‏ سعد ای سحن ديه تر یت ےر می ب ماح جم لحك بای جح ہیں aê‏ سو جع ممه حرم RO‏ بره ارجام ای شا سک متسس ل 


yT‏ ل 
بالشاف م رکو كرتا ے۔ ات الد كيل بھی ان لوكس جس سے بت جد تيرق زات كك 


ہے سے سے ہے 


کقوله تعالى: عي بت ذلك وبر بو و نز 7 


ماو ذحش یضار 


هوجو و هوجو و و و و و وو و ووو و و و و و وو و وو و ا ۱ 
اقرا ی مصئف: ایاک نعبد وایاک نستعین سل تین مسا لكابياان ےجس 
ینیل ددرن ول ہے :انا يساك نعمد ےو یاک تق لکک الفا گرب لكر 
دب ہیں یکن پر کی ع ہار ت می لقن کے بان ہو کے لی کون ادل کس الا تک ده 
شرا طکابیان ےء لیکون اول ےومن عادة العرب‌تل غاص اس الشات کے كت يان 
4 320 پرا لول کے دودر ےچ ہو گے پیل ای ری طور پران ہے شون 
سر7 گا N O‏ خی ر سل یالتار تك جو 
اتسامکامیان ہے۔ قب یع عبار ت اک عیارت کے سات ہلا حاف بل 
ترع۔ ایساک نعبد تیاو ی لا تکوش لكر ہے ہیں جن کیل بي ےک 
ال الات تن ید ال نطاب اددام کے اتقات کے لے دوشرییس مول ہیں 
(۱) وي طب موو متا كن ی الزات بو( ۲) خاطب تین علوم ہو اب ال انار 
تفا ی ذات الب ہے اوران یش بردو فال رشبل مو جود ہی لك بای تھا کیا ہاں صفات 
. عا ملو ييا کی اور بوصات گا 1 ہیں نے اس سے پارکی تال متا زکن من ال دات ول اور 
ناز یت کی وج سے متلوم یا نو ل الات ہوا 
٢‏ لالیکون ادل: ےا ل الات دوف دس ذك کرد ہے ہیں۔ 
فا ۱(0 :لفات تن غیت الا بکوذک کر نے میس زياده ول مس الا خت ا کی ٠‏ 
طرف اشار+کیا سکول اون کہ تقدم ماحقه التاخیر يفيد الحصرا اوس قصر 
داخقا خیب کی صورت ب کی ماگل »جک ياه نعصد وایباہ نستعینٹ رس تر 
عل ہو جا تا ہنانز ادلی الا تما ندمو و الات مرن الخ ال نطاب سے توا 
عسل مولي ہے دا مر کہ بادك تا یکوخطاب حي نان نف یونم ام 


ایا وجاجوے 6 وو وتض 


ارت ی ری 


رر رر ر ‏ رر رن دوجو 5 2 19 19:40 و 19 وود ده و وود وود و ۵و 
با گیا ےم زمشاہدوحاضر کے لے جب می اف وتام مقا مب حار سك بنا یاو 9 ۳ 
خطاب سك اند رح مک رب صفات ب ہور ا ہے کیرک ھی خطاب جوکیں ہو سک تو ب ینا تم 
صفا تک دجس ٢وک‏ اور جب ت بتکم صفات پر ہوا صا ت عل تی لك ال کیک 
كر ايها المو صوف والتميز بالصفات نخصک بالعبادة والاستعانة من اختاضص 
عباد كول لاجسل تمیز کت بعلک الصفات عن جميع الذوات ویپال‌زاده 
ال الا تاش بو اورصيخ بيب ایا وہ کے ورس جعرقے صل ہوتالیکن زیادوداالت 
على الا ختضا کا فا ده مال تہ ہو کال وت صفا کا کر ونی توء چ ر برصفات جوم 
تس ہزات الپاری لبم استدانت تون زات البارى ہوگا »نون یر فیس تک 
مورت می لش وکوک نی زاو متا كم اس بارى تخا یکی بی عباد کر کے ہیں او رخطا بک 
صورت عل ومع وال ہ ےک ہم فقط تیرکی بی عباد ت۷ر ہے یں اور تم بی سے انان کا 
سوا لكر نے ہیں اورا ری دمل یو لاجل تمیزک بتلک الصفات عن جمیع 
الذوات فى اعطاء الانعامات والاحسانات - 

یز اس زیادہ دطالة عل الاختقمائ کے شعن عل ب اشار وق موكيا کسام کے لے 
ماب هزاب سے تر ق یکر زر ورب ومشابروكامتا م عاص کر نے اوھ یھ 
برا لکہادت وا سماخ‌ت ل درجراحمان (اعبد ربک کانک تراہ فان لم تکن تراہ 
فان یر اک الہ یت )ما لد 
فاه( )و الترقی من البرهان الى العيان ےا صو الما تکادوسرافائرمیان 
کیا س کال الات ٹس عامدکو ھا یا گیا ن ےک جوا تتن پا مد ہے ا کالم باليربان 
دالرثل سے تر یکر عم بالعران ولشیو دما کر یوک جوم يبد ءاس ل کیا گیا > دہ 


صقانت سے کے ریا اور یلم سنارت زاجم ہوا گیٹ بالجرباك ہوتا سے اب ایا ک قير 


ویر 2 هذ کز جهن ے8 5 215 


0 


2209 9 و 00 000 0420 224 مو هه م 6 و هه جج کی وج عه 0666.66 
كلم بالعيان وا مشار ہکا صول ہے اورت كا كو درج موخ ار 
ْ لیا ا اقا کی رك ولج عم سے برک سه 
رای ابتاك ميل سه 

ذائاه:# و العسر قى يل دو نے ہیں اين میں افظ > وللتر ا 

دور میں لفت ےو التر قىادل الزکر نك بات و لتر ق ىكاعط ف موك لیکن ير 

اوردو کک ہیں کے اوراس می كل الا ینمی سک الفا کو اقتا کیا ا کول اتکی یوج 
الا تقاض ہو جاۓ ادج“ نی صن ال ان ای یال ہو جاۓ الپنتددوسرے نے کے مامت 
ات کا عطف ہوگا اختقمائس بعبارب اول ہوگی لیسکون ادل عسلی الاختحصاص 
ولیک رن ادل على الترقى یلک کے اتپا ےل کالفا تکی ورت یں (اول 
ام مخ یخی رعا تک ے مو ) زياده دا تک الاختصاص مول ہے اورخیی کی 
مورت زیاده لت ليس ہہوگی ال لٹ اخقرائ کا جوت ( بج قرع )پا موك الہ کت 
ایی اشکال »وک کوگ اسل ونت ن یہ وگ ک راشفا توا تیا رگیج کرز اوه رلالت ہو جائۓے 
رق من البربان الى العيا نکی طرف اور اکر الات شہ موب غبت کی ر ےلو زیادودلال گی 
ارق نہیں موی بش ترق بت موی ال خیب یک صوررت میں ب کل نس تن 
الہ ران الى التیا نک ققدان ےلوک جب ضیف ی نی بكا ہے نے عيان كب ہوالہز ایخ 
موجورو يبل وال تی اقتائ روش ہوا یں ےل فق امتصو وتات ۱ 
جواب:۔علامۃ زادہ ذا کا جاب دیا ےگا ور عط فی لات لتقا کے 
وت طوفف ما میس زی وز خصو مراد موی اورطوف تس یاو مطل مراد موی اورام 
شی لك استتھال ووتو ں ط رع سے ہوتی رق ےک بض متام میں زیاو یکی ماع فضل علیہ 
کے اعتبار سے مول ے او رض وفع زياد ملق بر وول ےکی نص غضل ملک اظتيار 


25 115 :8ه :0 32:2 5:55 3355:5535 5 کچھ 


کارا ری کا 


رر رر یں 11.2 
ل مون ملو 0 دض جس 
ال نطاب سورت می ز یادہ دلا تک الاختصا ص مول سے بت ہت کے ےلت 
راٹس اخنتضا کا وج موتا اد ان ےا نکی رنب دم چاو بیز ید مات 
ہے دک بست فید کےت اک کہا جا ےک یہت کے وش ےل کا وج د بال رہ ےگا اور ہے 
يدق ت ق ال فاظ سے ےک جو زارت حطر کی معاین ومشاب ہو کے ا ںکوصیغ خطاب سے 
تاداجس ٹوا می انی نرق بي کی اس وقت مول سے جبعیضخطاب سے اہک زا تک 
يكاراجا ۓ جو چا محا ين دمشاہرنہ تی ہو۔ 

پا فا ہ:۔ وتا هن مشاہردو متام ذ ات پا تو یکا اکن ہےاس بل قرا لن 
ترانی موجود »کل سے انام مشاب ر ہار کر ووم اگ چرب ار نی ےامکان 
ال بھی معلوم ہوتا ےکن بہرحال داش ذات پار یکا مشاہ رہ حقيقة جب زامن سل پر 
ترق من الير پان الى التیان باالى امو ديا أضو رتكا اک امطاب بوا؟ 

اب :ےگ بد عاد کےا عراش کمن سوک الئل وج ما سے جوایک عالت را یاو ے 
انس ها لمت را وگ مشاہ و وما تھ ےج کیا جا تا ےک جب ما رست زق فى جناب القدرل 
الپاری تال ہو جا نوا کال استفرا کو مما کہا چا تا سے بہاں وی مشابر دومج مراد 
. ے كما قال السالک فی سبیل الله 

خیالک فى عینی ذکرک فی فمی ومشواک فی قلبى فاين تغيبٌ 
ہا بھی اک مکامشابدومراد یہ الكش اعت راٹس ۔ ۔ 
#لآبنى اول الكلام : سے مل تقو یک اتاد ے۔ اعنوان دیدرت لمات 
کےعلاء اہر کےلحاظطظ ست تك ادرا بك الات علاء طن کے لاتا سے سے دو کیل تضوف 
تی ن وتا ہے اور جو عارف ہوتا ود الل موس ہیں ابتزاءاورانتياء 


مالفا وي نک لئے یضار ا 
ا HB 76 a‏ 


ا تراس لوك ٹیل ا کو ود اومت لی كر اليارق توا ور اس ء الصا حاورا کی تون 
می نظ رک رنا اور کی مصنومات سے ال کیلمت شان اور ساطت پر اتد لال چا ےکی 
ينك جال ےت کیره اورراض کر سا وا ء پر یات وناب کے بعر انام 
پل س ےک اسشنغ راق فی انار من سوک او اوروم ال مشاہ ہے ہوا سکو ور شود 
کل ں ن باز وست( کہ ہمادست وعدت وجود كما قال به المبتدعون )ام 

کاتیات میس جہا لک نظ کی جا فتناخداء ىك زا ترس انوارات دبا ولبات 
۱ ترا لم و فيضا ان ا ی کال ما کل میس اننا طول ہو جا تاس ےک اسے كز ذات يار تال کے اور 

1 2 7 كوس ن کے کرد نکوستارے باو جودموجودہو نے کے سور 27]) 
سے اظ رآ تے الط ر رال سالك وصوثی کا مشاہ ول ہوجا تا س ےک ای کے سا 
تام زی مو ج دق و لين انور بار تھا فی کے غا کی وج ےو چ زا نظ زی سآ کی ۔ 
ین يتسا لک ہے( کسی رای ا موی دص لک يبال ے تام سک یر اللہ 
کا درج شرو تا اور درم ہوتا کل کسیر اش صفات يبل مول ے اور 
صفات پارئی لاتحددو اتی یں ٢اک‏ در يبوب ان سيد اسن جيلا في رح ال نے ال 
ریت ے بیا نکیا 

شربت الحب کاسابعد کاس فمانفلھاالغراب وما روت 
ت ای طررع سور فا می بھی يبل رش ریش پاری تال کے نامک ذک ہوا اور بعد ہ 
صقارت لا ش بصي ریب کر وک ابت را مہا کک ہو جاے اور بعد وعیشہ خطا بکاذگ۸گیاگیا 
تكرودسا تک وعارف اب متها م مشاہردو متا تال سل السلهم اجعلنا من 
الواصلین الى العين دون ححو ‏ بد وص و مو 
۱ امین يا اله العالمین - 


سی سیر رہ 8 


اکر يك دكن تارق 207 


#ومن عادة العرب: 7 ۱ 
ات کے اتام ست کا بیان ہوگا جنا اتا تک چرصو رل ہیں کی اسلو ب تین مہ کم 
غوبت۔خطایت۔ برای كك دوسر ےکی طرف اضاق تک یآ موص چم ول - 

( ا )من الغیبة الى الخطاب (۲)من الغيبة الى التکلم 

(۳)من الخطاب الى الغيبة (٣)من‏ الخطاب الى التکلم 

(۵)من التكلم الى الغيبة (1)من التكلم الى الخطاب 

ال الات میس دو كت ون ایک پالنسبیرالی تكلم رم ان پت الى ناب بتكام 
کت كلت تر یہ للكلا مم یکلم ہد یھ بنا اگو کہا ام کے الات ےملک کا 
سام کو ہہ تان صو موتا سکره مو نکر نان سا تک سکن ہے اورخاطب 
کے اظ س ےک شال ہکا ےک تقاط ب كل جد بدلذ یذ کے قت برخ اسلو بكلام سے سرور 
ولذ ت عاص٥‏ لکرتا ےا توف نابات القات ر حتیٰ اذاكنتم فى الفلک ريق 
بهم يبد کنتم تقاط بکیاادربعدہ بهم عل یراب رتفا تن 
الطاب ال الغینۃ ےد ومر یآ یت ل ہے ۱ 

۱ والله الذى ارسل الرياح ا ىلول فسقناه الى بلد طيب 

۱ ل بیس یط انی ذاتکوا ام ظا ہرصیغہنا تب ےی کیاا ل کے بعدفسقنا سکام ےاج کیا و 
يبال الات من اخیی الى ام ہے۔ پچ رقاخی صاحب نے مرا سمشہورعرب شا رکا 
ایک مشک یاک الات ترا یکسا ال او را تكلا كرب می ی 
ماباجاتاے چنا نراشعاري لا 
اول لىب المد || لخب ونم نرف 
يهال ایی ذا تاوصیف خطاب ےتا ط بکیا کل رتا نک رکا تی و کی ان 


و وه 5522ا2ھ۵2+22٭2وہ وع 


اقرا ری فک ےل ار ہا 
2 5 زا جع بت بقع بل 02 92 نا 5 17 19 :147 113 117 :137 تهج ا وع جا تا زع 
راك للب ا شيراسيية وال ابوالاسو دی موت کے وفت قي 
کیا تھا يمالك دفا تيت , 
م بي سب كا سل :رک دات اش مقام می بی ہوگئی >( نکی وہ سے ) 
اورٹھوں ے غا یآ دیس وی اورو 520 ۱ 
اشمد بکسر الهمزه وبکسر المیم ال يت كانام سج ل ے فا سبال ریف 
سوليات کلک ذف ران سے ایح سض ت .باکر اشمد بکسر ین ں ررح برك 


۱ ور 2 م ہے 


سے ےت رش ناک 
پڑنے داسك کے اور شورب يم والی مر میس بتلا ہو نے اس کے سهد 
ذى العائر شس وخاش اک دالا الارهد ]شوب مکی م والا۔ 
بل با تک ی رکا مر دی نی ذا تكوبناد ب ےت یبا بھی الثفات ہو اکہ ييه 


اسآ پ انا طب بناج تھا اب ما مب سے کیا تد الا نذا تن اغلا ب الى الغ جوا 


وذلک تس جساه‌یی | وب ناغم آبی انز 
اورپ سمارااطراب :زان ال تمرك مچ ہے ہواجومیرے يال الوالا موو کے تخل کی 

اس شع می جاء نی ٹل ءى بی عم سے اپ ےآ ری اک يكبل بات ثبل 
یرن كا مرت تا و اس ی الات من الغبية الى اکم ہواں 
فانلدو:۔قاضی صاحب نے مرت عبارت میس فقط ودک اتقات کے میں کے ہیں باق عار 
قالخ رر دیا نکااخفراج رو رک سوه اس طررح ہوگاکہ پا کے تیر 


ہب ےس ١‏ . 
دا لتاقي .دمک من اب 
7 ا يتلق یبیت کے اتک الا تن الفبية الى الغلاب ۔ نز خطا بک زکرم کے 
سات لای ہا ےکن ن اب الى الم ۱ 

دوس رک بات ہے لقان صاحب نے جو اللطمات کے بادك کرک ليا > 
ال یس تین لفات یس ےآ رک دوالنات من انقلا ب الى هرت باصن الخييت الم ود 
یدق ان بجی رکآ تقال واه ات نہیں الہ تس !اتقات اب را نم الى افطاب ہے 
کم یا سذ اس سےمعلوم ہوتا ےک اص ل شع میں الا ت قتصورفت بق ہے 

() ترک بات یہ س كال پیم کے الات همقل و اقا 
اور خلا پک صخ استعا ل ليا و يبال القا تن | ام الى لطاب ہواال می جر اور مہ 
7 ا یکااختلاف ہے تور کے ند :ديك الفا ت تب نرق نا فی ےی اک 
ط یتک پات شل ذکرہوااور بعد شل دوس ااسلوب ا فیا رک گیا ہوا كواتئما ہیں گے 
اک رفا قتشا ے مقا م اسلو بکوچا تدارا سے عرو كر کے روما اسلوب اف کیا گیا ہوا 
الات کر ال کے علا ماک سكن ديك جم وروالا امامت سے 
ین ار تهنا دقام سے عرو لکر سک دسر سلوب ات رك لي کیا موا لکوت علا مہ ا کیا ۱ 
صاحب الات كت ہیں و ربب 17 اور ہور ميس تگموم وصوصن سے هک جو 
الا تكثرا 7 رہوگادوعندال کا کی اتات موك 5 یوکس ےک توا فا کنر 
لسکا كل ہوووکٹرا جو ری الات مو جنا نيران س ےومالی لا اعبد الذى فطرنی 
واليه ترجعون ال بل بقر ید تر جعون متام خطا بت اکہ ومالکم لا تعبدونیکہاچا تايان 
اسلو یتک متت ركي ا گیا الات کٹ الک کی ہوک بات اتا شال ہوگا اب ا س شع ريل 
ٹن الغا ت تذل و ایک و ان شس الاقمو ری ایک بی هاور جر جوک الشات قصوری 


:اف ري نک گنی ناري 
جح ا نا و و 2-5 و وود دوجو 9 ووموووووووووو ال 
وی ایک ہے اس یی اص صاحب نے انار هكردي نا رد سو 
باه عل مب ران علا سكاكل کا فش ےک تفاس مقام ہے عرو لكر کے دوس نے 
اسلو اقا ركنا کی الات ہوتاے_ 

ییاضر منضوب مضل »وما لحف من الَاءَِالْكَافِ وال 
ڈور ی شیر منصوب ”صل ے اور جو اس کے آشر میں پء اور كاف اور عاء گت ہیں | 
روف رید لین کلم والخطاب وله لا محل لها من 
| موف كلم اور خطاب اور خیب تكو ييا نکر نے كيك زیادہ سے کے ول ان كا گل اعراب ثيل | 
الِْهْرَاب کالتاء فی آنت وَالْکافِ ف اراک وَقَالَ الیل يا مُضات 
اضر امک کی تم اود ارأینک کا كافء اورظيل سف كا ین چزول کی طرف ضاف ے 
لها » وَاحْتَجٌ بما حکاة عَنْ بض الْعَرّب ادا بل الرجل اقب 
1 ہو E‏ ج پآ وی سا دسا کر با 


07 لا یر و ی وو و و E‏ 2 وار ی ی 
رای الشواب › وَهْوٌ شاذ لا یعتمذ عليه .وَقيْل هی الضَمَابِر ء وی 
اس كول جوا رل سح جما 2" گر ایت شا جال يناث امک یاس ام ہیں اوریا 
مده لها لم فصلث عن الْعَوَامِلٍ تعر انق بها رک فضم ربا 

۱ کارا یں بك جب اوم اک کیا وال ےوعد وکیا ناو تاد لا وان سلس تماد گیا | 


یا لتقل به وَقِيْلَ :الضمیْرھُوَالْمَجْمُوْعُ وفریء ( آبّاک) 
2 اکرر فل موی | ال سسا تور لكر اورت کہا )دلول پچڑو لک مو حاورا یاک 


و “م و 5 ۳ مس که EES‏ و 
بفعح الْهَمْرَةِوَ هياك بقلبها هَاءُ. وَالعبَادَة: اقصی غايّة الخضو ع 
Een a!‏ مج جه وا موجه مسبج مج بدو hy‏ لاطت جه تس رس مورک سس راجت د یس بن مهمو عدي يع men‏ بوه ميتي وان 

| بق ْ اه 

۱ مزهي ھاگیا ہے اود ھت ک ہاو اء سے تد ب کر ی باه ستاو ریاد مت انا ديجا تضو] ۱ 


ng‏ ہو وه ھی 


00 ۲ ا ورب وُو عَبَدَةِ إا كان فی غَايَةٍ 
أ وتلل ودای ےب ربق مع زیت تمل ول لکردودامت اورای سس ب وہر هت | 
الصَّفَاقَةٍء وبذلک لا تغل لا فی ضوع له تعالی 
بناوٹ والا ہواور اک لیے لفظ عپادست ال خو رع وتضورع كيل استعال ہو ے جوصرف القد که ہو | 
رای صنف :و ايا ضمیر منفصل ےاھدنا الصراط المستقیم تک شون 
بيت بر پٹ کے بحدالغا امف رو فرج قصو ے پم وایا ضمیر منفصل ے والعبادة . 
کر ایا کک فصل ينين ےجس مس جدا زا ہیں ان کے باد ےک چارنرا+ب اور 
دور اء رت شاذ ہکا بیاان ے۔ پر والعبادة ست والاستعاننڈنکعبار تک تقو واصطلائ 
را بیان سب 

شرس نامب ار لجرك دج خر کال با تکوسب مات ہی یک سجر نخس پر 
ال می اختلاف ک کیا وت ایکا یہر ے ایک 2 ءا کک یر ے اود درا جر 
ازاگ پچ اریز ویر ہے کیا يبل جز یبر سے بادوسری جز یر ہے را راوج 
شر چا دوم ری جز مز ادام ہے با رف جا يهال ایک فبقتجا ت کال ہب اذ یر ےک وم 
اک یر ے اد ریک طاق عا تک کا ا ی طر فگیا ےکا یا ککا ایک ج ویر ستاو رز 
بھی دوس ایر ہے ہلا جج ستو کے درج ل ےاوراکراول جز ولي اتا ہا ےڈ يمر 
ل کا ایر كا مسلك بر ےکی رج ماو درمز ها یتین 
زجاع ی بی ینا کا مسلك بس ےک بت واو یر ے او رجاف ف ها ءال ے۔ 

مھ ہب اول:۔ان ار اہب ٹل ی صاحب ردیل را اول ببس مور 
کا سب کہ ایا ککا ایگ جز یر ہے اوردہ ج بھی اول ے اور تال قرف ہے ا مئال »دو 


EHRE 


راو بے رف لبا ۱ 


جاور هي سك ےک ایا کی دایا دا اک و ہے اور اورگء اور یا هر 
اورخطاب کے میا نکر نے کے ے ہے کی کات :می مان سے کان طسب فور جات ہے 
س ےک یتوم بین یل سے ای تلو 3 یتیس او رجت نہیں سووائت ےکم 
يك کلف فیس جک رخف رام رز کے یش ا نمب اورت زر اور ترا 
يه راورا نکو زار ہ كنك ہیں لب الف ف چ ورتم لكر و ٹنیس سے الہت ار 
یدک ای تو سج »ديل يسيك ار ینک مفحول احم هاب بیش یع میں ستقمل ہوتا 
. ہاو دکماجاتاے ارء یتک زی.سدااب جب الکو لاک ی مزتاجاورووازيدا 


موجود سج لهذ اال سے معلوم موا كاف زانده ہے ء نز يبال اطب کے اظ سکاف ی 
تتبديل مون ات هي دیع اورشفعول ایک ر ہتا ہے اس با تکوعلام تن اد 
نے ذکرفرمااے ۱ 

دوس رک بات ہیر ےکہ ار أ یتک کان جواخج ری کیا جات ہے سا اس كولفظ کے 
سا كول من ست بال ےت ا سک ی تق یق تکو عم تک ھا ےک اسل می ایکا 
من تام بص رکا سکیا نے داعا ےاور رزست اع ری سپٹ اپا ر کے لاو 
كر السبب ارادة سیب اضر لک ایک مراد چاپڈاار أ يدك کت اخ رن یکرت از 
ہے اب ا مشیر تا 7 7 ےک طلب! حضار نظ رکا ف ز اکر موی ها مطور پر 
رل 2 رج ہیں شا ارایعک ارا یعکما ارا يتكم الہش اوقاتارأ يعم اگل 
عی رید لک دی جاجا ہے و بح عام طور برا مرف زان ہکا فكت تبري لك سة نار 
اورسيخايك کی د تاے۔ 
هب ھا :ل بن احدفراہیدب یکا كسمي رجز اول اور خر جز مشلا ایا کی جس یا ورای اک 
کا ف اوزایاہ یش پا اسم ہیں اور مضاف اليم ابر رخ کے لے ,الک مھا و رلک کم 


ویچھ 9 


إا بل الرّجُل اَي فياه وا الشُوَابَ 

جب؟ دی سا رسال کت رکا ہا سے اہی ےآ کال کے اھ ہما کے سے ہہیا ہے 

اس ایسا شی کی اضافت الش واب امم ظا ہرک طرف ہے اورقا نو ناجب ا یک 
مفاف ال اح ناج بنك ےا ا غير یق بطر ان اول مضاف الي ربسا 
جوا بن انور :۔جمہو تی نکی طرف سے جواب یہ ےکآ پچ کردوقول بلور 
اوه کے باذ س ےکیوکلہ ج او ل عیبر ہے نامر بالكل مضا كيل مول ہاں 
مشا کیت بوک 
مہب الیش :نايرج ہے اور جز ءاول تون کے درجہ یس س کوک 
رب ضر ہب رک می یرآ خری جز ل يهال افعال کے مات ا تسا لك وج ے بای ہیں 
جب ا نکوافیاللی ے ص ل کرد گیا افوا كل طر ان سے يكيل ایک بز لاس اکرستون 
کے ۱ 
جوا بنا a‏ یر زان یکومانا ہا سے اورا تون مانا ہا ےا ال ےلازم آ٤‏ , 
ہےکتون اکل سے بڑا موعالائہ يرال ہے۔ 
جب را :کو شیر ے ما مور استعا ل بمو مول ہے ائات نج بک دعل 
وی دک ی اس لے تر یدکی ضر در تک شآ 
(۵) ترام ت اڈ ہ: ایک تر مت تاک از ایا او تروق این یس 
ہنیک دوسرے کے قائم مقام دسلا سبل ايك قراءة شاد وی جع روک پا ےتپ ب کر کے ہت اک 
بھی اج پل ریس دوو رج ہی ںپکسرا لہا لہا ال ان سن قر مق و ئیں۔ 
. 7 والعبادة اقصی غاية الخضو ع: يبال والاستعانة تک عبار تک لغوق 


أ وي كركف الیضاري 


و 02 12 15 :18 و ون و و ود :1 1:15 2 و 10:45 و 90 ون و 4:15 15 دود و وو و 4 رھ ظا ه وھ 
واصطلارح شر کا بیان ے نان عباددت کا لغوی مق موتا ے ترلل اورذات 76 ری 
دج لم لی مع رچ ر یس ککوکہاچاتا ہے جورات دن انس فول وتيوانات کے ال کے نے 
دوندى مان >- ثوب ذو عبدة بہت مو نے سا یوگ دوگ یگھوڑ ےکا 97 
نایا جانا کارت کاب ری بنايا جا تا ےہ اب ماو رتاو کے ات با تکام کش 
ذا کا تھا اوراصطلا رح شررع می انا در کی ذلت وضع کے ا ظہارکوعباد کہا چات ے اور 
رانا در کی زا تک ابا رال ذات کے ے ہونا جا ےک جوذ ام کال دد ےکی ن 
مد اور وه ذات پاری تفای بی ہے ال کے عباد تک اختصال بذات البارق »رقم 
عبادت میں ے سلو ج کی ے اورا جز بصلوق يبل سے ایم الا زا مہہ وی ے نمل میں اشرف 
الاخضاء(چرے )کا مون الاشياء( شك )بر رک وک انا عا ج ی وذلتكا اظهاركيا جانا ےلہڑ ا 
مم الد کے لئ هی ما مد و نمی( ت کول نوس 


ليغا :علب الْمَعُوْنَةٍ وهی_مُا ضووريَة ء غير ضروْرية ۱ ۱ 
اور اسحاغت نام سے مد طلب رن کا اور ہے وٹ ضروري و گی ۳ غير ضروری | 


۶ د سم مر رو 


رالضروريَة ما لا ياتى الفغل رنه کافیذار الفاعل وتضوّره رَخضوّل 


| اور رور و ےجس کے فل ال ندم ونيب تاک لکا اد ون لود فاع لكوام تکام مون لور لاور أ 
آلّة وَمَاذٌة یَفْعَلُ بها فیها وعنة إسْتِجْمَاعِهَا يُرْضَفٌ الرَّجُلٌ بالاجطاعة 
اد ےک عسل ہو کرت سآ لہ کے ذر لت ا مادہ کل انام پا ےک ادرا مم نات سه ہونے کے 


وت[ کاس لكان تراد جا ےگا 


ويح أن یہ يكلف بالفغل وَغَيْرٌ الضرو رة تَحصِيا مَايَتيْسّرٌ به الْیْکُل 
EL‏ ارو تیان جزه وک الارن زر یٹپ ل1 سان لو رہل ہوجاۓ أ 


ضرف وی نک اناري 


اس حا یت جات ای ای بت بای دک بای مس ما افيس اام يي ار 


1 سل گالراجلة فى المفر پلقایر علي امش » از يقرب ایل 


02 سو مس ere moe en‏ يس ها س کا رر رر ری سس 


ا و ل تا 


ا e i U‏ کک کک س کے کک کک مر ی عه ی س ج کے سے کے س کے کے و یس کے سے کہ ہے ی ی ساح کے کے کک کے کے ی ت ت کک ی 


EERE سس کس چھئے۔‎ ER PEA OE مہ ےتسس سے سس‎ ARR 


و تخد هس هس سس سا عام ماما سام عاسب ما ہش شا سے کو ہم دع سے کپ ا سک ود سد بت سی کات 


نے ہر ہے ا 


1 اورمراد تام مقاصر میں صوے طلب را ات تج 1 


تج یساس ال ال ار ا مم 


227 الْمُسْمَكنْ فى الفغلین بلقاریء وَمَنْ مع ین الحفظةء ا 
| اور وو فھلوں میں ی شر جنير تكلم مر ے اس سے تور مت والا اور فر شح چو ای ران مقر ۳۳ 


یه مت سیلتات مس سے ویپ درد هب ات مإمسھمے مہ ہشے شاب مب بت 


وخاضرى صلاة ال الْجَمَاعَةٍ مَاعة او له وَلِسَائِرِ ائر الْمُوَحَدِيْنَ ار ع عبادتةً 


۱ اورحاض م۰ اتر دیںیا تور یڑ گے وا اور مو وسن ماد ہیں .ایی ےا ب ادت اودر سے ستاو ون کی پا بت أ 


تم به ۳9 على عضو ولذلک قال ابْنْ ۶ 77 زضی 
| كيلك اوتم شان ہون ےکی وج سے ورد ار 000900 
الله‌عنهما مَعْنَاۂ بذک ولا عد غیرکت وتشد 
اک نھر کسی" ہم تيرق عباد تك تے یں او رت رے فرك عباد تي لكر کے 
ٹاک شم گا گا )ں چز لر كيك للد سے لك 


اضرا رن نک آفی اوي 


2128 © 9 225 ج6 12 12579 18 301285 12 2 12115 19 26 وع 


ا ا ا ات ات جات اس کا ةايم لم ا مت ملاس سر ص امھ اس که هر اس 


مسوم کک ی ی ج ی ی چ چ 


0 سط ےا ل 0 سب 73 وبل ٹل | 


2 ۳ 03 مس 7 و زی کے و مرو مس یہ ا ںا وی أ ا ردو ا 
| 'ؤلا وَبالذاتِ ء وَمِنهُ إلى الْعبَامَة لا من حَيْتُ انها عِبَادَةَ صَدرث عنه | 


یر سي اور راس ہے اد تك طرف( يان )ال حثيت ےی لده 


ال من حیث الا سةد شریْفهة له وضلة مه ممه وَبيْنَ الْحَيّ »| 
ایک عبادت ہے جوا سے صا د چول ہے ال حثیت س رده یف ش ريف لمت ےج کی زات 
بادك ہے اورا حيثيت ا ا ان ے 


إن ارف انا َج وُصُوْلهُ إا سفق فی ملاحَطَة جناب امد 


۳4 


ا أ اس کہ عار ف اوک ول الى اراس وف كقق بر جيل ووماسوق اید سے فا حب بوكر ات يارق کے لاحل ريل 1 


اوغاب ما عذاه » عنی ان لا بلاحظ نَفْسَۂ ولا خالا من آخوالها إل ۱ 
۱ زک اف ذات اور الخ اال کی کی بواہ نہ کرے اگ ر کرت کی | 
من حَيْتُ آنها مُلاحظة لَه ومد شب یویلک فطل ما حکی الله 
REET‏ 
خبیبه جِيْنَ قال لا خرن ان الله معنا علی ما خکاه عَنْ کلیمه 
اسه 2 عیب( ہہ و )سکیا انمو تال تحزن ان الله معنا بت 
ال كلام > کے اش نے سے گم (می علیہ الام ) سے قل فراع سے 
ین ال إن مج ری مهد وَكَررَ الضويرٌللسَصِيْصٍ على أنه | 
| أ نہیں بان مسعسی ربسى سیھدین .اد ایا ک لوک رل گیا باتک رج 24 | 
هان به لا یر »وت اد على اامیعانةلیتراقق زوس 
| لقال تما تصرف دی ذات ےا کے سواکو هم ایکا تقد سکس 


فاد ا ا 


: عند وقول شاب لغم ارش تقر 


E‏ سم 


سو وو ردو کہ یں 


ذ یک ک تیه وافیتادا مه بن يشا َه ء عقب بقل 


۱ | اراس صادرہونے وای عبادتکا ون اوروتعت اط از رر ا 


ی يك سيد سه شم 


مر قم 


نستعین لِيَدُل على أن العامة ابضاممالاییم وَلَاِيَسْتَِبُ له 
ستحين وكرفر نياج كال بات يرجنال صل ہو جا ۓکرحباد تج ان زد ی ۱ 
إلا بمغونه منه وتوفیق » وَقِيْلَ الاو لال وَالْمَعْنى عبد 
1 غراندک سك کک لیفورورس سا »لاب سے لملا نت لساك مین یس امال لے ہاور بیت کے ٤ک‏ ښک 
مین بکت_وفریء بکشر الشژن فنهما زهی لا ی تیم 
تن بل میں ( ہشن پروردگارہم ری ع د تک تے ہہیں اس حال مم لک تیا سے مد دی ال ) 
م س ان دول (ثیر اور ی کے ون کوکسو رڑھا ے اور ہے :63 
نف نهم یکسرون خرف الْمُصَارَعَةٍ سوی الْيَاءِ إذا آم يضم ما بَعْدَهَا ' 
0 یہ لوأك مرف مضارع تک وكسره دتتے ہیں سوا یام کے جيل ان كا ما بجر موم تہ ہو | 


اغ رای مصنف :و الاستعانة سح اھدنا الصراط المستقيم کل تمل اياك 
نستعین کیائقینکررے ہیں جس میں7 رسال يان مله -(١)والاستعانة‏ ے 
والمراد طلب المعونة کی افر ہیا چا رسطو ريل اسان دک لغوک ونر بیان ے۔ 
(۳)والمراد طلب المعونة سح والضمير المستک نک مز ف ول پار ےش 


55 93:53 5535:5555: 


لاق وي كركف ضا 


ہي بس سس انا لا ها جنا 929992-94 2٤4+۵‏ هه ا 5 وو ود 3 3 3 
ایلوا لک جاب ہے(٣)والضمیر‏ المستکن سے ادر جک م تع ككلم کےاستمل 
ایک سالک اب ہے( م)ادرج سے قدم المفعول کک ای می تكلم ل 
استعال رای سوا لک جاب ے۔(۵)وقدم المفعول ےوکرر الضمي ر تک قزم 
مفعول کے يار كا تكابيان ے(٦)‏ وکر ر الضمیر ےلت العبادة كر تقول 
روا لكا جاب ے(ے )وقدمت العبادة ےقرئ بکسر النون زم ارۃ 
على الاستولة برای ہوا ل کے نین جواب ہیں -(۸)قسری بکسر النون ے اھدنا 
الصراط تلثراءت شاذهكايان ے۔ 

لی پات اک کوان کے تن سد بیان مو كد لوك مسا ارہ ہو سے - 
ميلم (1):#جنائي والاستعانة سے والمراد طلب المعونة تک استهل دک "‌لفوی بيان 
کیا ےک مہ ياب استقعال سے هن طلب المعو يد ورمعو ری مص ور کی کون واعالة ےی 
لفق ایراوطل بک نا رو ووم بر سےمحو رورپ رضروربی مو رور اكوك ہیں 
نس کے نم كن واحدا فل برف رت ای ت رمواورانہان مكلف بی نو سا یکواصول ف 
لد .سکیا ہے ءا لك نش رز میس اقدا ل تتاف بل اضرا نے فک رت 
نک مت استطاع کیا ے اوراستوا کت یا سب وجوم باعل مات ای حاصلا) اور 
حا ی تین گیا رف سے ايام راغب انپا نے ترت کا مت اورلفل گیا كم 
استطاعت ان چت معان كانام ےکن تن کے بع رانا ننک ارات فطل ےل 
واوروہ معا فی يار ہیں (1 )ہی صو تال تنعل فا علیہ )٣(‏ تصورل ول (۳)تصول 
ماده ج دكن يرف ع لکوتھو لکرے ( ٣‏ )حصو لآ ہک كل ج سے فاعل چا شرل الما دور سے 
ال فاظ سے ان جاد چزو لک عطاء ("ن ذات الپاری هونا ) معو ری ضروری تاش شاوی 
صاحب_ نا ی قن واے کیا دی رانا میا کاذکرک ال تقر یدے۔ 


ود 1717 25 45 © 25 5 42 5 :1 5 19 5 15 15 19 1 


اغف وي فرفر ضاري 


کے کے جس سی رج 
رل توقای لان ے کوک لا اس نے وباب کاقصدار مس 7 
معو گیل رو صف فال بایان بھی ضا فکوطز یر گے ای اعسطاء اقتصداء 
الفاعل تنو معو یام ہے يبا بھی عذ ف ضاف كنار ےگاای كاباحة 
تصور الفعل ا ىر دوسرك دوش ںی عزف ضاف ؛ اک اعطاء مبدء حصول 
الماده واعطاء مبدء حصول الآلة ۔ اس د ر ۃ لن کے باد می اتشان ےک لیف 
مکی کی بردارو ماد سار چ اشتلاف ہ ےک ندال شما ع نیف مالا یلا ی چا ہے اورکند 
اس یف مال لاق باكل بانب رال اس شاقن ےک نیف هقرج 
نیو اش رداک ملیف مالا بلاق کے جوا زک قو لکرتے ہیںئیان درک قول 
نی کر تلبذ ااتفاق 6 ہوا۔ 

عم :نوراک ہیں جس کی وج ےن لآ سان ہو جائے۔ اس بل 
موقن ت ہو ہی ےک اسان پیل کی چا سکن واو رسوا ر یکی جاۓ ال معو ب خی رضرور یر اصول 
ف کی اصطااع ٹیس فد رہ رہ ےب رکرتے ہیں اکن احکامات عا ليم تلد رت امسر کو رط 
قرار و گیا ےلکن فد رت مطلقا لیف کے لیے دارو يال بل انا نت طور اف 
نر رت سره کی مكلف وکاب مور يراس ل کہا ےک يشر طور بہ بہت سے مقا مات 
یں نر تاس روش رط عت زکو اور بل - يسرك دوضصو رٹنس می ںیک لامک جز ولك 
مو جود مو جا کرش ےل سان ہوجائے يسك چز ين جوفاع لیر قري کروی 
ملا توبات :تر فيا تکرش ےل ساك ہوجا تاے۔ 
فوائد(1):- اياك نعبد واياك نستعين یں مت لہ قد روج شالت وا جا عت کے 
رہ بک تار ے وہ جرب انا کو روچ رک طرر بورض مات ہیں اورف ريد انال نآو 
اق افدال ما نکر نان ما ہیں اورائل سنت واا ع کا ہب كسب میں بند قار 


ج 3۵362 نہ ف 3 28 ق ۵ :3 6 3 8 8 


فان ف رتش نيضار فو 
پیر وه 95 9018 05 9 :3 1:15 19 شر میم ور سم نس یٹ 


سج اورظق با ری تھا ىك طرف سے ہوا جلو ایا ک نع بد وا یک تن بیس ای طرف اشار ہے 


کراے الد امحبادت نما اتنا رٹیل ےاوراعا 1 پ کے اھ یں ہے عبادة مبا 


لوف ےاعانة منک . 

فا رو( ۳): حرا صوق ع اور ی ا خب ور بس ل ال 
ان ومتا نہ سے باک تے وكاس الیل نم ری نی اد تک تے و تسبل اين تدان اور 
مھا كرو انث عباد تك کے ہچ سے رامعا ہما کے ہیں اورمشابده چا سے ہیں۔ 

فدہ( ۳):- اياك. نعبد وایاک : نستعین ل اتاک زات الپار یکا هرس 
سوال یہاں سوال موتا كددنيا و رو دوسرے سے اعا تک طالب سکول وت کا 
نظام ی اک بے موو ف ےکہ ایک دوہ رسے سے ضرورت کے وشت پروطلب 1 مال سے 
ریا در 

اب :باصن فاگ صو یں ہیں (۱ رو یدش سل پال ا کی ےکر 
مرول بک جائے يول شاك ہے اورترام ہے (۳) خی رکوخی تخل جما جا سین ا اس مکی 
استوانت شلات تلبت دمو ے اور برعت ے۔ (۳) خی رک وس بھی خی تل 
جائۓ ( کہ پا اعد ما ان )اور مکی اعانتبمت فى الشررع کی مو تا ونر 
قش اكيم سے دو اکا طل بک رناءاولیا وا سے دع وا 

سل( ۳) :وا ارطل با موی ے والضمیر المستک نک عذ ف فول پر ایلوا لک 
E‏ 

سوال :اعد باب استفها ل تعد بروضفجول ہوا ے اک ج ایک مفعو لت ےا یاک کین 
دوس رسفو لكو کر ہک رن ےک كياد سح 


تس © 2 2 یت 55 93 55 5 5 98 


ام ا وي يركف ان اوي 


5 22 و رر جا جا نل لی رز 12 185 ود رر رر درس ۵5 ذا ا 2 و 
چواب(۱):- تی صاحب نے ا کا صراح دکوئی جوا بال ديا بل فتقا عذ ف مفعو کی 
عیارت ای تالک فی المهمات كلها اوفی اداء العبادات۔ 

جوا( ۳): نا لک( جواب ىہ هکت تور ىك مفعول کے فاط سے دوصوتیں 
ول ينض اوقا ت تول تعر یکورازی ام ماه اج رک رمفعو لکوحوذ ‏ کر کے مضہ کر دیا 
جانا ہے ذ مد تموم کے مالک نے کے لئ اور پال کے لے مشلا فلا نی اعطاء کےمفعول 
ككفي سکیا كسم صل مو جا ےک قلاں بذاك ےکی ان کت می 
تن کل برچ کا عط اکر نے دالا اوراس عل مالغ مال ہوتا سب اور دمک صورت يرول ے 
کیل مت ری کے مفعو لکومراد می نو را با جا حاورا یک ای ہوتا يان تسا رک بنا یہ 
ک ری کے تت حذ فکردیاجاتا ہے جب موم وکیا یہاں یاک تین یس دول 
صو رت مراد وکن یں کی نگل زیم مقا م ت مک فاد اودمبالخ عاص لكرنا سج 
کک نا چ يطلب اما کر ے يدنام چیزوں یں طلب اعا كرس تو اس 
ٹیس رتمک ان وا اورم الى ہوا »اكول اس مغعول ہو تو اعا كا اختضائ ل موموم 
تھا اوراس جوا بتک ف قاضی صاحب نے پا مہا کہا رپچ ایام نمی کی 
او مفتول ایکا مراد سج ل ادا العبادات يكن طلبألذ تار بقر ہہ الم الکو فكر 
دییات اورا کی طرف وى صاحب نے فی اداءالعبادات مل اشار :گیا ے- 

مل( ۳):۔والضمیر المستكنت ایک سوا لكا داب ے۔ 

سوال (1):سسورة فا کا قاری ایک ہوتا ے یف شع کون اسقعا کی یمم یل ہو 
لک یہاں ارگ زکامتقام ہے ال تھی ے درخواست راے؟ 

سوال (٣):۔‏ دوسراسوال بی ہوتا ےک اگ ری تو تہ کے مات ميف کو بھی قراردو بجر 


© 2 5 © 5 2 © 5ا پر رر یت 


HE‏ و 5 15 2 وو (ع جج ق جخ 35 2۰ج 


عیفش لا نے می کلت دکیا ے؟ 

طل پ کک کے سوا لک جوا ب اتی صا حب ادر ج سے ديل گے اور یل سوا یک( کے 
جب قاری ایک ہاو صخ لا سک کیا مطلب؟) جواب پیت - 
جواسی:-قاری کی تن حایس ہیں با ارح تن الصلو وگ ال فى الصلو ؟ پر وشل فی 
الصلو کی روصورتیں ہیں پا دنل فى الصلو 3 وعد ہی ممح ییاعد > اب اكرقارى وال فى الصلو ج 
وعده موب کی يط تمع لا ناج ہ کیہ ای وفت قاری اورحفظہ فر شے مراد ہو کے (۳)اور 
جب واف فى الصلوع مع ید موز اس وق کی صیض تخ لا ناج سک رال وت قار اور 
جماعت وا" دی مراد مول (۳)اوراگر ناریح فى الصلو ت وت اس وقت وہ قاری اورقنام 
موحد مرا رایع کال ناج اوردا تع کے مطا ان ہوا۔ 

کاب میں ييل وال فى اصلو واٹی دوعالتو ںکاجواب ہے اور خر میں تارج صلوة 
کے فاظ سے جواب ے۔ 
اكتراش:- یبال ایک عارل اختزا وت ے روا ن الصلو و کی دوصورلال ل وا وکا 
ذکرکیا اور مار صن الصاو 3 کی صورت کے وقت اوكالفظ وک کیا ملاک ما سب می تاک يبد 
کی لفطل اوكا کرک رتا 
چواب(۱):سوا راو ے۔ 
واب ( ۳):-ل میں تا بل شید ید وال فى الصلو او رارج صن الصلو ول ابا الن 
کے و رمیا نت اوكا لفط زگ رکیا اور واش فى الصلو کی رولون‌صورتل عل تنا بل شر بر قاس کے 
دبال لف وا كاذك کیا سا ان می کی اشاد وكيك ارج من الصدو و کا تال راغ ف 
الصلو کی دوفو ل صورقال میں سے میک کے مات ہو سنا سه ۱ 


© 8 5 © 5 3 5 لی © 33 8 5 3135 5 8 5 5 


لظم وي نف اي 


سے ا چرم وھ وو یر و 
سيل( )اور ہے یراج ایام 7 کیک قاری ان عباد یکو 

دوسرو لک عبات 29 اع اللهم وان كانت عبادتى منضمة بانواع 

التقصیر لکن مخلوط بعبادة او لیائک فاقبل عبادتی بوسيلة عبادة او ليا نک 

واجابة دعائى بوسيلة اجابة دعاء اولیا نک کاس میس شی باقی غلا لق شش اولياءالثد 
بھی ہی كرتن کے واسٹے ے می ری دعا بھی قبول ہو جات هگ انم عبادقی مخ ولاک »ال 
نات من نے ا عنوان ےج کاس ےک درج می لف طور پرامیوقولیت ےکبوللہ 
تن ور ہیں ۔(۱) تما مکی دعا بول بو-(۳) تما کی مردددہو(۳) شیارا 
کی روود س بک مردو و ی شان رضت سے بھی ب اورقا مکی مقبول ہو تور ےی او رال 
1 مقبول اور کی مروود پک شا ل رست ہار کے !یہ سب 

فى میل: 5 بو را تا کے مت فقہ بھی محلو مو اک با لع نے ایک بی عقرض 

د ں كلف چ یں کرت چیه ہوں اورت روک اب متلہ ے س ےکی شت ری تما مکورد 
کہ ےی تا مروتو لک ےاور اس کے ے چا أي تقبو لكر ےاو کور رک ےتا 
کت ان الصف نبل الام لازم نآ ۓ »اب ای رع ایک جا عت می لپن اول یعادت 
جيد کے در ےچ میں جاور عصا 5( عا کی )کی عپادت ردک کے در ے ٹیس ےت اب 
تنام لومردو ول ے پٹ شان رضت پار کے بيد سے تما ملوقبو کر نا لقصوز اب لول 
كنا لورضضكوروكر تا جب ہے با رک تقال اي كلوق هراس تزا ے كيك 
يشدف بل کرک عاد کوت تور وب كومروووفر ]ا ديل رابگر ہوا 
کروهقاری| اد تکودوسرو کی عیادت یش 7 لها 1 رتلاو بت کے درج شس 
انا پاہتا سے شوت صلو مع الجراع تك ورای کی ےا کال یت شتا عاد 
عبادت ول ہوجاۓ اورمقولہ کے با تک ند ماو پا نی لل جات سا اتو چوک یبراب 


068 66 8۵ 66ے 2 3 8ے 2 9ق 


وه هو 2 و موه وو و و وموووووووو مهو 
موي 5 

ستل( ۵ ): ترم امعو ل ے كروك ل نف مم مضعول کے پا کات کیان ے۔ 

سوال :نل ب ری ور پہ یہاں ایک سوال ہوا مفعول معمو لك میت میس ہوتا ہے اویل 
ا کیک یت یل او رعا ی ای ا گر یں ہو ے پیٹ شی قرم ہوتا سے 
ی سے مالس مام س عل شی مو ر م اورمفعول تی مقرم ہے یر ضا سے 
کہ ج او شا یی ومقا هلال سك كك كولكل ہونا چا سے ۔ 

چوا پ :الل متام مکی ہو نان سبق تھا اک مغعول مورخر اويل مقرم ہوتا يكن غلا ف بیج چٹر 
ات ک ےک ا گیا سروه كات نف يم مفعو لك صوررت میں بی وال کے تھے 

یاو م ن لفظ اک جم هذ ات میور نول السمستق لان 


یعظم بغایه التعظیم ومن طرائق التعظیم التقدیم فى الذ کر و قدم المفعول على 
الفعل لاظهار عظمت شانه تعالی ۔ 


کٹا ےو الاهسمام به سی اہتنا م بالشا نک وج ے قد مک اک جب ابا کت جم ہے 
ذاتپارگا تیا ست اورقا ری انان سا تا مكائنات میں مطلوب ای وا ہم واقو ؤس 
گر ذات متو دكن ہو تیگ صفات امال ےا مع طرق أفضل والافشال 
ےا قاری انسا نکا صب تین سوق یی ہوا پا ےتا انب دی كرمعبود رق 
ہوقلب ٹیش بیش کت با ری تا لی ہواور جوا در( سے پیش اتا نت خو رم وضو پچ ر ہوہ 
جب اس با تکواہمیت مول و شور ےک یقدم الاهم فالاهم - 

كلتالث:-والدلالةتعلسى الحصر ضا نظ اح الت خریغید اکر کت ایاک 
مفعو لکوت وکین کے لے مقد کیا کرد وا ہاو کو یرال کے ل کی بن ےا 


8 33 55 3 515585:35: 


زغ وي وك ركني التضاوي 


>أ٭أعوےےجذد”و٭ووتۃووجأ(ووےھ22وو٭”٭2 52 192 9 


ا نکیا تر دید کے کہا كيال حبادت ذات بار کے ساتھ ناض کے وت 
یم کے چون کی :كات ہہوتے ہی کر حمر کے لئ ہوتی كل ابام سك ليا تت وی 
کے سك اور ال جل تقزم سے حمر مراد دنا در تفا میں تھا اس قفا لودو رك نے لے ریس 
اشر رت اب ن عباس رش الع کٹخ رج کی )کروہ ال مام میس تقر وحص کے ے 
بناتے او رع کر ے ےا رل ولان خی رک ل ے صع ری مبھاجاجاے۔ 
كلدرالع: بت یم ذکری موافن ہو جاۓ نيم وای وض ری سکس الا مرت 
تنا مكائتات سے ذات بای تال قد م لول دو مبدراء مق كائنات ہے لو جب ذات ہار 
0/1 
چاے(کما يقال ليوافق الوضع الطبع ) 

کک نامس :# ال متقام میں تئ شعو لصوت می بارتغا ى نے عابدوعارف وقار یکو 
یہ بات ان كال عابد دقار یکی نت راصال واولا پالزات عباد تك طرف ی مول 
پا وش کی طرف ی مول م اسيك نزعبادت لك ددعابد ریز سو س هک بیکبادت 
کے صادر مورت ہے باک عباوت کی ال یت ےکر ےک عبادت الک ایک کا زر یج 
اور وسیل ے وصول الى الک کوک دكزر وكا چا ےک عار ف وعابد/ووصول ال اکا مرج تنب سی 
عل ہوتا کت وی ال کر کے تخر فی جناب القدس البارى ہو 
جا كلمانا نکوز پا دوف ربا ذات داحوال سے ہو ہو ای ذات واحوا یک صو روتوم یی 
ال تيتس لد لدي چان وال شوب ال الشدے۔ 

قائره:_ولذلكىف سے ای صلی ام کے لیے ناء ورک ضورعل السلا م پگ 
ایک وت مصیب تکا ٹیش یآ تخ اورانمبول نے فر مایا تھا خضرت ا وبک رد ان ری عون 


ان رمع اور نضرت موی عير السلام ی وقت مصیب تآ یا تو ان ہوں نے ان یق مکوفر بایان 
21 10 جا :1 10ج :1 :1 15 :1 © 15 12 :3 15 185 :19 18 2 ۱ 


ازفا ری مك ركز نيضار 2 


وہ ود و و جع و و 5 35 ۵5 5353 523332532 55323 53 15 5 23 3 3 180 2و اج و 
معی ربی سیه‌دین مفس ین جوا رات سف کرو لکوت رت موی علیہ 
السلام سك قول بے نح فضیات دی ے بم فضا میس سے مناسب مقام يفضيلت ےک ہا 
کر یل نے با رک تھا ی کان م ييل کی اورمعیتکا کہ بعد می سکیا رالات 
البار نل زیادہ اکل سے اورتحضرت موی علي السلام نے میک ذک رمق مکیا ےاورر کا 
در مومت رکیا اکر جر وو متوجرالی ان تيان مرب رعجیب كيت لت ار حطر ت موی 
ا ےکی اس با تک ایکا تمرم سے اللکانام(رب ) ييل ذکرکیا۔و ينه 
انآ ات می او ری فضائل ہیں ان يل سے بي وجفضيلات ک تفت موی ايلا ٠.‏ 
معیرت با رک کا اخضال نظ 11 ذاءت کے ساتھ خا سکیا ے اود یکره نے معیت 
خداوندئ یکا انتا فتن اپ ذات هساک كيا بر ر فق صد اكب رفاوت ش رکف 
کاس نرت صر ان اكير چوک شا ن یال مول ہےاس با ت کیا لكيس ی علا بلغي 
کن کے مطاب گت کرت اورم یں فرق ہوتا ےکم ال زا تک مدنا سے اورتان غر 
کے لے بون ہے( ال با تک صرح لفت نس ہ ےک توف اوران میں فرق لوف 
ات( جو بعد یآ نے دالا ”)میس ہوتا ہےاورتزنن افا( چوک ر چکا مو ) ل بوتا بن 
اورت ن کا فرق لخت می نیس لا ہاں کے لاک حزن فر ایک ر ےس ان 
کے زان ت رای ہے اپنی جا نک یں کان یری جا نک یرد کیوکہ بارى تیا کی 
میت شال »ال سے شیع کے اس قو لکی 2 ديد مول ےک حط رت ابدگرصه اه 2 
کار کے نار ےآ نے کے وقت شور ول ہیا اک ہکغارکورسو لک ربکا پت پل جائے اور یکر 
پا کلف بت ری (نعوذ بالله من هذه الكلمات الخبيغة ) _ 

سيل( ۲)و کرر الضمیر : يبال سوال تدرا جو اب ے۔ 

سوال: مین یس ایا ک نھ ری علیہ سے اورایاک نین معطو ےل بو عطف کے 


gg‏ .° «هوموووجووو 


الت نزاوي كركف الرضاوي 


کہ رت سس ۵شس 
ایک ہی مشعو لكا زک رکا ف تیک ای کےقر یہ سے دوس رھ لک مفعول جز وف الا جا سک تھا 
رورت 
چوپ :باوجو دعلف تين کےمفعول کے پیا لے میں ووو تال كك مقرم مو یا 
مو شر ہو مق م مو ل میں و صو وی سل تن تال تاج میں حمر وا لقصو رم سل تمن تھا و 
ال اناكو فخ كر کیلع وو رت یی لی نحص کر کے بن کےمقعو لکو کرک ر 
دا جیہبچی ےش حفرات نے ققاضی صاح بکی اس عبر تک مطلب او ریت ہو نے 
ادر یکاک کیا ےد دیے ےک اگ رمطعول صن نو زر کي الم اياك نعبڈ نستعین تی 
كبرد يجان تو عط فك وج سے رح ا جو حادت داستھان كا اختصاص بز ات اليارئ 
لیکن فردآف رد عبات واستوٹکاا ا نها اج تین کےمفعو لک کرک دیا کیہ 
معلوم ہو جا ت ےک فرداف روا عحبادت واستوا کا اختال ہزات الا ری تی ے۔ 

کن ملا مدیم کون رم هچریت ديرك ہاو رکہا ےک اضرا 
صاح بك عبارنت سے ان یلٹا ی کر اختضاض يمو ےکا احا ل تب ہوسکتا تیا جب 
عط فکیصورت می تک فخلين نی مفول وا رکا قو کیا جا جا اور یگنت يهال 
تو نلا مفعول تیر , > الت مز فک صورت ييل پل کے مفعو لاور رنایا جانا ے 
ید باقعو ل تو وو ٥‏ لكا مفعو ليس ا كرال قال فی کے گرا رمفعو لک 
زک کیا جا لبذ ايارو و جیروک ے۔ 
ستل( ے):وقدمت العبلاة سوال قد ر ے٣‏ جاب ہیں۔ 


سوال :سب هس کا تام می تز شیب الفاط منا سب لو تح یک تی نکومقد میا پا اور 
عبار تکومو ر رکیا جانا کون پاد تک تقب ووصول الى الد سے اور اسان کا "ی طلب 
معو ےرہ باس کان سای تناس “مل ل ے بعد وعبادت کان 


9 2 


سم 5 5 35 55 2:13 یرپپپپینرر ‏ یہ 3565 
»وت ہے ھالاکنہ هبل ال کان سكي كيا جا کي سای هنن جاب یں ؟ 
جواب (۱): ٹس الا مرکی تفاضا متها استها ہکومقد مکیا جا یبال موا فتت زو 
2 لات کو کیا جا الزون م جف صل ہار ہے ہیں دوباتی ر ہں۔ 
فا ئده :1ت کے1 خری الفا اکور و بھی کے ہیں اورفو اص لبھی ,فو اسل جع فاصل کی وہ 
7 نرک رف جو ایک آ ی تکودوسرکی سے د اکر کازر لد ے ا كوذا صل کے و كيوكل 
ال خر یل ہے تا ابعر بدامول۔ - 
رد مع درا یکی ا نک مطلب ہے كوو جس ےی ی بن ا ط رح الآ زی 
اف ےکی آ تآ پیت با خرى الفا اكور كلت بل - 

را نکر کے فواصل ور ء وس ووم کے ہیں یا #صورت مرا لنت با مورت 
مقارت دهم کات یک ال الفا ی ايل یسے ہوں بي رالا سور 0 کاب 
مور ٥فِیٗ‏ رق مُشُورِوَالییّتِ الْمَعْمُورٍ م 

اور مقار تکا مطلب ےآ رک وزن ایگ ميان الفاظ ایک جلت د ہوں کے رب 
العالمين »الرحمن الرحیم »ملک یوم الدين . 
چواپ( )تیب ذکری لفن کو تر شس الا ری کے فلا فكر کے انثا کرد اکطلب 
عابت کے لے نکنام نین بطل ب کون ہے بھی ای کن مکی حاجت از 
اس کے لج سیل اد وکا وم وود ےک وسیل ہے دعا رن شیور اد وق يت دعا 
کے لئ بعش بن تيا ل ستول دی فرت مم سوال سے یلاو تد لکردے۔ 
جواب ( ۳):.. رتست کیا( اہ چ راما م رازى فی کی ری كلها ے ) 
اشمار هدک نات سابقہ سے مرس نوف یکت ران ہے وهب سب كما مقام ل نہ 


سب سس سد رب پر ررییں 


۱ ۲ اغ نا وي ركفي ضاي 


و رر و وو ود و و وود و رر دوجو و وووو هو هو و جو 
عباو ”ود ے اورنہ گے رت سی اهد نا 
الصراط المستقیم کی درو سی تو اس درخواست سح يكبل الا تذل لك بی ایک 
صو رمت كا فى ها دم کو پٹ لس اور ال عباد تک جز صلوة کی ےک ہس می اشرف 
الاعضاءاہہون الاشياء ےدک ھکر و وضو ع كا تا رکرنا »وتا ےج باقعو ر کے قي ل نظ را اک 
تع کہا تو اس میں تو ہم ہوسکتا تاک شای ہے عاب و قاری اس عبادت میں خو نل وال میں جب 
وک برک شام تھا اس شاب جب لبراوراستقلال فى لپا وا اا ل لومک نے لج ایساکف 
نستعین س کو ڈگ کیا کا ل عبادت نی" ار اعا تہارک ٤ے‏ ول ورشمرا اكول ذال 
کات کید گت 

مت مت رک خدمت سلطان بھی کی منت ازو شیا لم دم ت اشتی 
٣‏ قیل سے كب بک طرف اشار هي جيل ریب شو ا وز کر ےک شرو رس اق 
دوسری نشور کی بک زک كي نض حطرارت نے ایک تن والى واو مكوحاليه باكرا 

٠‏ انع لنبری يتكلم سے مال بایان قاصی صاحب نے ت لک کرای ضع فک 
طرف اشار وكيا ےء وضع ف میں اختا فک یا گیا ےئن نے فو وضع في میا نکی ےک 
مضا ر شب تکوھال با چا ےت واو باو یط کرک کیا ا تا ال لكواكر مال ما جاۓ یرت 
شرو کیا جانا ہے يهال توشر سے سيك داوم ہ لاوما ملا ثيل - 

ین ا کا جواب دای ےک ہم مار روا چم فل کو عا كال بنار ہے بل 
ایاک نستعين سے يكل نحن تدا کے ہیں ایساک نستعين الك ثريا ہیں اور 
وال مناتے ہیں اور تمل راسم لوحال واو ء کے زر له ينايا جانا لبذ ایرد انج ینیل 
کا خرکاراس مقام می عز بت دان کی توج ےکر ںی يؤل جا جب الجر کے اخ قصور 
پور وکا ذف کیب بنا ےک رور تال سهد 


وس سس سی 55 55 5 53 3 


۱ تاو نت کے ار 


58 5 5 6 5 وم ری کا تو مه 

۳۹۳ اعرا ہاگ شارخ وا تا نون کے مطابی حال بنا گے 
ہیں بس سکوعلا این ما نک نے بل ٹیش زک کیا ےک مضا ر شب تکوداوء سے حال ال وف 
یس مایا چا کت کہ ود کلام میں وا گر دمیان نو ملد سیسات متام کی 
وچ سے انتا ربوا وکر کے مال ينانا rt‏ 

دبک یف یو یکا اک أخب د اخنضاص بالجباد تكاكم اور 
مقي كردي پاک صن حال كسا تيوق یں نہیں ول انتما عیاد ت ی مطلتا ہونا چا سے 
اور اخضال اعانت بھی مطلقا ہونا چا نے +علاوه از ہی ها قصود ے سك اختصاص عيادت 
تقل ايل تھے اوراختضا اسان ایک تفلا لک ے ہےء اکا اک سی نکوحال با 
ابید یت میں خی رتل ہو ہا هک الاک نویس 

قرا وت ناذه ہنی مکی لشت کے مات تكرت وف اتی نكا ابعد ج تل موم بو 
سداس پا کےا نکی مرک تکوکس رہ سے تبر لکد سے ہی لہ ایہا ںبھینعبد اون کین سا 
واي ال کے پارے میس تن با ل‌ضروزی بل - 
(۱) مت روف امن کے پار سے میس قا نون -(۲) ہما کے بارے میں سوا كا جواب - 
(۳)اذا لم ینضم بالعرصات بابح رل قرکاڈائرہ- 

جنا نیہ ادلا تاو نکی تن شقوق ہیں (ا) وہ پا بک رج کی ماش یسور این ہو اور 
مضارغ مقر ان وای می مضا رر کےتروف اشن (باء کے علاوہکوکس رود سيت إلى مشلا 
باب یتلم -( )وه با بک ٘ کی ای کے اول میں جرہ صلی ہوا کے وف امج نكو 
سوا ياء کے کرو و ہے ہیں تب كتهب وظیمرہء( ۳ )دبا بج سکی اول بای میں جا مره 
مطردہ بوبه تفعلتفاعل,تفعلل وی رہ کےاواب می مضارع معلوم لات صرف + 
اتصرف, نتصرف کوتتصرف اتصرف»زتصرف بناج ہے۔ بيلغت بی مکی > 


وع :1 1 10 چی و جو وع 351232323 وج 33 3 


اقا ري نک ايضار . 


مت ےچھوسژ ی ۱ 99 
ال از ات -ا کت ہیں (۱) رود بتک ا کی یری سور 
طرف اشارہ ہو جاۓ )ب سکسرہ دبع ہیں جا کر مز وسور هکل طرف اشاره ہو جات 
(۳)واس با بک تیه ہے ہزرہ بس وا باب کے ات کس طر حم باب انقھالی مطاو ا 
وال ہوا ے(کما فى فطع لقع )یط ر تفع لی مطاورعءدتاب كما فى عَلَمْنه 
سم اتکی وچ ے یاب فعل مضارغ معلوم می بھی ماسواۓ یا روف انکر 
مرکم تکس رود يناجام کا گیا > 
ان تنوںشتوں میں ے نین شكس لق فان یکی وج دا یاچ 

2 اش :اس باكترا اش موا لقا نون لاطا ست و سين تكروب اچ نے 
هقی صاحب نے ٹیا کک رفک وکیوں شش رر کیا ال تافو نکی شتوق لاش میں ے 
هراتس يالك . ا ۱ 

داب (1):- بارا تمرف نوفیا نولیان - 
جیا بپ (۴): فا ہوتے بسح علا يراي ون جيك سک چوک قرامت ٠‏ 
شاذہ اورشاذكا مطلب تی بی بوتا ےک خلاف اون ةيبان 7ت و نسرودیا 
باه کول قرا ی یں ے۔ 

اقترا سک رہ ال وذنت ت وتا ےک جب مابح شوم د مقر هل حرف اتن 
وم ےت و وروی »ابا - 

چ واپ :لبعد سا باراد ے کے نز وير يب ستل ,ابعر مو تال سب 
اکن لبذ سرد یا ما دق مت ساح بک اکا شی مر 


ل کے ہیں اوش بلقو د سک 


0. 


سے کر ورس و لو وو جوا 
دزی یس نی رالل سے مد ماک اورا کو ھار نے 027722 حم تک چا ری 
سسکا اک ڑ حص سي راکو رصاح ب ت نی لک ساسا وال سس رگوداج ھار سے 
باکر مر میں ان کے مو“ خطاص الا رشا د سیل الاسترر از سے اموز > 


بث اسن ری واس تد ادگ یرالد 
استھاشت ارگ امام :اول استهانت واسرد درخ تسام کے جاسة ہیں پراش 
کے اجام کہ کے جا بل کے ۔ استھا رت واستمد اد باهر (ن رال سے برد ما گے )کی 1ش 
ا 
(ا) ادا كعلاوم روا تقد پال ا گرا لت مدچاہنا۔ 
(۲) فرکوقادرپالز از نہ کے بللرا سک قر کوخ داتعا کی دی مول جا گر يراعتقاد 
رک ےک خداتوالی سے قد رت هالک کے بل اور دا رہ وكيا جو چا ےک رسک ہے۔ 
(r)‏ أ ف ركشل سے دیتاسا مامت ین لآ لرادرذ ریس سامت رداق توا 
وی کے ۔اا تی ری صور تك پر چن سورس ول ایک لراعتادا کی زندہ سے ال امور 
عاد يل اعدادچا ہے جو عادۂ اسان کے افیا رل دیے گے ہیں اورش رما بھی انا کار 
ہو تے ہیں ملا یو كبرد ےک فلا تم ییک م ردو شلا ای دز - 
() وی يكم ده سے اك ا مور خر عاد بل اعا مت طلم بک رے جوشرعا وعادة انا نیک 
تست سے ہام ہیں ووو انا نكل اس ہوتے شون کی ا ےم شرا اد هر 
(۵) كا مايا کی دفات کے بعدال سومان فيل واس لكف بس مدعا هد 
(۹ )کی ییاد یک دفات کے بعداموررعادي يا ابت امورعاد يل جووفات کے بعدانمان 


کی طات ونم دت سے با دما ہیں دهاشلا لول سل "كايا لاي قر 
وڈ یزیر 142 :1 412 117 15 1 15 2 زر ری 


الط ماو نک نف اهاري 


ووویچہوأوی9و ]وأ 2فۃگوودوعجووەوععوہ 229228 ٭ جج و وه جو 5 
یش ميرك امرادک رو یلو کے مش سے شفاء دو 
(ے)امورعادیبادرغی رعاد یل کیا ایو زط دیاوفات يافنا ةسل سےدعاکر ےک اے 
فان نی یاو كابركت سے براجت پور کرد 
(۸ )چ کول نی ياه کسی خاش وفت میس باذن ای از وک رامت کے طور اک سے کپ 
یاس ہو؟ ای وقت بل بان ال زکرمت کےطور راس ے برد درخواست 
کی چا کے واو وہ جا جرت امور عا دي يل سے ہو یا نم عاد نبل سے يكرمج رحال ال صورت ٹیل 
لا ياو یکین ذرییاورسفی رکھتاہواو رت عاجت رواخداتعا وی خیا لكر ہو . 
اکا :اب تسام ہشوگ دكاتم سه _ 
گم سور اول استجات بالغهر رت کنا 2 سج ءاور 
موا سے وق (بہت پرستوں ) ےوش اک فیک بھی رتال کے 
وجورکا ال ہے وہ ا کا انل بلج بال وت دا تخل کے و جود سا مساق با ری 
تخل علا ووی ادر پال ا ت کہ کرای ے بدا کے ہیں 
گم سورت ما لی :دوم ری صورتكا شرك موک کیش ريدت سامت کوک سركي کن 
کا ئر کو ہے ووی اسن بت لکوقادر بالذا نئال مق ست بللا نکڑتحرف بازناثرتی 
کت ےکن ا نک خیال تاکان بتو لكوافقيارات ما ہو کے ہیں اس ك ودب شرا 
تفا سح اخقیاراات عاص لكر کے جات کے اندرتصر فک۷رتے ہیں اور باس وغل 
ہی كدان ج تات می سح تالک مشت خاصہ كنا نل یہ اک مات كام بالا سے اف 
بع رو اانا اد برعم ير سل 
انار سے و رفصلا ليت ول - 
یہاں شرگن اورقه تون فيد مك فر ھی اج بيلق ريست ے 


جج 66666 ۹ 08 862ج 


اضما قاری نف هاري ۱ مت 


- 


هجوج 5555۵555 5 2356 53 3 55 5 عوعہ و DAHA‏ 85623 


زديك صا حب قب رسب امور جن تیا یکی مشیبت فا کا اع عكر صاحب کے 
پاچ سے رتخا کی می ت کی وا ہو انی سے ين تبر ستو ں کک یرال خلاف رمل 
بذك وج سے م رار قاط ے اور برعت اعتارگی سج او رخ گنام ےکر يي لايس کول 
شلك تی قت بي ےکہ بده ال با تکا قل مكمالك از رت کے !نکی جائيات بال جو ۱ 
چا ےل رکا ہے او رق يرست ازن ج ی کے تال ہیں »بال اكركول غلولى الا عنقا دک وجہ سے نیم 
اش کے لے اخقتیار بلا از ج اعتتقادكر ےگا ني يقييا شك م وگا۔ ب رعا ل ورت ا کی 
شرك ہے( ا للا من ۱۰۱) ابو کار ناد ای می و لوق خواه نی ہو يا ول ہوخو ستل 
ادا کار تماما مورالل تالی کے تیش یک کے كول پل طور پے 
يبال بش رليدت اسلامیہ نے صاف صاف جلا دیا ے او صوق ران ومد بیث اس پرمگشرت رال 
ہی لک داتفا کے يهال الى ناب اود متخت كام بالك ليل جو خا تقال سے ترت 
اورا يا رات حأ ص کر لين کے برخ وو ستل ہو کے ہوں ‏ سلا وديا اكوا کر درگ ہے 
سينا جو لك رورت ہوثی ےجب خداے قادركوا سك با کل رور یں 

رآ نكم مل اشتارک وتا لک رشاو رای 

(ا)ان الحکم الالله امر الا تعبدوا لا ايا ٠‏ 

" (۲) ان کل من فی السسٰوات والارض الااتی الرحمن عبدا © لقد احصهم 
وعدّهم عذاه وکلهم آتيه یوم القيئمة فردا- ۱ ۱ 

(۳) بيده ملکوت كلّ شیء هو يجير ولایجار عليه 

(۴) هو الرّزاق ذوالقوّة المتين . 

(۵) من ذالّذی یشفع عنده الا باذنه. 


(٦)وما‏ تشاء ون الا ان يَشاء الله. 


و 5 555 5 و 


21 


02ج ج جه ج جج وج وه و وع 65626869966وھ 


(>)انك لاتھد ی من احببت ولكنّ الله يهدى من يُشاء. 
(۸)ومآ اکثر الناس ولو حرصت بموء منین. 
(9)اهم یقسمون رحمة ربك نحن قسمنا بینهم مُعیشتھم. 
او رکٹ اد بیش هیارک اک برشا ہیں : 
()لن يَدخل احد کم عمله الجنة قالواولا انت يا رسول الله قال ولاانا آلاان 
يتغمدنى الله بمغفرته ور حمته . 


(”)يابسى عبد مناف انقذ وا انفسکم من التار لاأغنى عدكم من الله شيئا 


الحدیث۔ ٠‏ 
() للع لامانع لمآ اعطيت ولا معطى لمامنعت ولا ازاد لما قضيت ولا ينفع 
ڈاالجڈ منک الجد. 


()انما انا قاسم وَالله یعطی . نش اص لق رآ فى داحادیٹ ال دال یں کہ 
رای می کوک قوت خوا وی ہو لتقل طور تکار - 
۱ جم صو رت ارف ۴ تاق اکن چا وتن تا نے امور عاد ہے ل بندو کو 
کیا غ 
ددست ما لک نے کے برک بن تقر یکر نے مین تیا ىك ہشیت خا صهكا رکشل ہر 


شقان ب 

1 ۱ : ا 
صورت راف :يصوت اد راز وكرام تکاوقت ال ےی سج جج کہ 
صورت ر۸ میں1 دات- 


سورت نا اس :- ورت پا تا 1 کی یشان روعالی توت ا نکووذات 
ع 0 


اش مب دىبہہہری نی 595 


اغلا ون فكركنيالضاوي 


22022 62 و و و و و وه و ود و :12 :801 وم و وه ون و وه و و 926 ٤و‏ وو 
مومت سال :-يصورت تامام كول امور معا دیش الى استهانت ےی 
“نت تو ی شي مستتعاان منہ کے اقلا اورخوداختیارکا وتا ہے اورش رجت نے ایهم شك سے 
رو“ ہے چنا خی ادس نایک اد ری رگم میس رکھنا یہام ٹر کک وجہ سے ہی 
22 سل وچہ وی ورت کے عدم جواز 1 ے اور امور ما دیادرتگ چوک ونا ت‫ 
جک صل رمق سے اب ال | مور یل اداد عابنا دا ورزر ی ا 
مستتعان مد کے استنقلا ل اور ہا فار ن ےکاشبہ پرا موتا سه اورشرلعت نے اسققلال کے شبہ 
ےک کے 
حم صورت سابع :۔ سورت درتقاقت استهانت ی یں ا کو مھا زا اتی نت كت ہیں 
07 سی اک ورت ےا 20 جنران طلب ماج شكال »و بل اش ت ل ے 
دعاك جالى س ےک الك فلاں نی یا وٹ برکت سے بعادت پور یکرو ے اب زاكتققون ے 
ودک اکا يرهض لالز سل زره کسام ہو پا وفات کے بعد وه زتره کے اتم 
ول مس کی دال س كمال سے دعاءاورشفاع تك درخ اس تست يق چا کے ابت 
رکه ے وذات کے بحر کی روف ارس پرحاض رم وكردعاءوشفا ع تک درشواستگرنا 
چا #اوردرست سب ۱ 
تم صوررت فا ملع :۔ ریصور بھی جام ے جوت كرامت وائباز بل خلاف مات امور 
اہ مو اک ے ہیں ان لاتق اشر كوف تل ہو وپ يكل ار تن یک طرف سے می 
»ول کے کر بکونظا ہرک ر نے کے لے صادرہوتا ے کوک غلا ف عادر تکا دوام وا مر رطرورئق 
ثيل اس لك الى استمانت بیش دا نشور يرجا 00 ۶> "0 
اگوی با ف ف ماما موا ان عیاض اوراس وت کے فص ویش ہوگی _ 


ذؤوؤدوٰکددددوعڈرھےحهجمموھجەہمأوچ 


۳۱2 وي فیط اوي 


HEBS 191015171910 و‎ 

خلاصم: ہے سك استعاخ تک چارصو رل چا اور جار نا جا تا ہیں اور جوا زگ شرط بیس کر 

عاجت رواخ دک غير الث کی ہو یل موش رجہ يایلخا لكر ے۔ 

دراه کے اقام :سامت بلغي رك طرع نداء بلشیر ( الکو کارنے كى صورتص 

اورا نکم یکسا جا تا ہے جن سکیل صب ذ مل ے : راو يكار سف كل او دویصورٹس ہیں 
(۱) زنوکوپاراجاۓ (۴وفات کے بع هگا را 

۱ رذ هواس ےکی تین صو رت ہیں ۔(ا مکی زط ریب سے كار هوك عادة تر جب سے 

نا جات ہے.(۴)زخد اونا یات یکا سے رای شل ددصورں ہیں ایک یل ارناتصور ب 

شوق بت میس الہ اکر ے۔( ۳ند ماوعا تبات كاد اوراعتتقاديي ہکوہ دور ےکی لے ل 

:بل رورت جا تم ہیں اور سر اام ے۔ 

دفات کے بح يكار ےک ىك سورس ہیں۔ 

(ا):۔ ی ایا مهد من کے مرا پرچا ادا نپا 

م مرن چان ہے برطي ل مرا کے يال چ اکر تام مل استعانت ( بطل بكر )کا 

تمر کر ےک یل ساب می كذ ر یکی ءاب اگ جس سلام کے لئ نداء موتو ایی تدای 

»ول کے علا عام نین مار کے يال چا ھی چا ے د يبال سے معلوم ہو اک تضوراكرم 

یلک کے روا زی برماضرموك بصي نراءالضلو ة والسّلام علیک یا رسول الله كالفاظط 

كسا تسلا مكنا درست ہے »بماد سا كا برك ال پیل رو ضرا ہی عرش بو ملا کو 

تورم کل کے و اس یلاخ ور سل ول - 

اور یدام علادہ موق ہو رالا نی مالسلا م کے پا حاضرم وک رق ا کا جوا الا طلاتی 

ثبت کیک قب میں انیا السلام کے سارع بی کس یکو الا یں ہے ء الب خی رانا 

اللام کے پارے می اعقیاطای عل > كران کے ارات رسوا کے لام سٹون کے ندرا سے 


255 66 6870 568662 22و وکج 


ا م مم سو مر الى . 0 
روکا جا ۓ۔ 

صورت(۳) سپ نہ ہو یجس شوق بت سکره 
تایبا ءوجاسع- 

گم :سورت کی جا ہے ء اور بذ ركان دن کے ماک رشع ری اور اشعار کے علاوه خی جونداء 
کے ور پر خطاب ای جات سے وواى دوم رک صورت می وال ہے حت :شوق ولب يبل انہوں سه 
نراءکاصیغف مایا ے ا کا تقد دہز کاک سکونداءکی ار ہے دودور ےکی مروفتت سنت ہیں - 
(۳): ی عانقا دسے پا ےبد ددور ےکی سے ہیں ۔ 

عم :یکو رت ٹا چان کیال ثم لكقيد وشركيد پایا جانا ے۔ 

(۳):_ نا 3-5 1525 
گر وا كودع رو بی هت سه 

تم :۔ یصورت ال شر ط کے سا تج هالا ےگردہعی شی آ یت با هد یٹ شر لش ٹل وارد ہوا بو 
جی اکنشہرشش السلام علیک نها اَی بھی نآو سے امیر ےک ا بلح 
استعات ونداء بالف کی سب‌صورنش اورا نک معلوم م وکر جام او رناجا ئزصورقل يبل اتيز ہو 
یاج وگ -اسبمنا سب معلوم موز س کنا ر کے مز ید مدان کے ے ان داائل برح یش طور 
بكلا مکیا اد نل ےم بت کین زبانداستید ادوا ستھا ری بالفير ونداءبالغهر کے جواز پے ها مطور بر 
سرلا لک کر ے میں اور اکر او م لوكو ںکوان دلا ی ےہا ت اورظظان می ڈا ےک 
شك هال ہے مار كلام سے ان شا ء ران الک تقیقت معلوم وم ےکی مگ رمق رمہ 
سود ير بات «دبارهذ ان ای نک رک ہے كراستقيد اواوراستی مس بالغ جم سک وپ كرت 
یں هی سک ىاو قوامورئير. عادي ل مطلقا اورا ہے بی امو عادیے شل جب ا لوف رت 
مال در ہے يال یتو وتا در بالات یا شا ریھک يو کہا چاو ےکم می ریا حاجت رگا 


۰92133:32 1: 4215: 2 15 21 


طض سین ۱ 
2)7 ۵ذر مد ”)22 وه وود و هوجو وه وه 6 وع 

هرا ایام يناده اورا اران سے ال رع دہ کے لقن تیال سے ان 1 ہے سے 
دعا كد سيااان سے ب سک کم مير وا داتعا ى تدعا كرد تہ ا نک دعا رن مشابره 
اش ی رآ وعد بیث ےا ہت مونو استمد اد ہار ے نزو یک نجل هاورورتقيقت 
ا ںکواستمد رکنات ا ڑآ ے ور ال رورت ت وکل کے نام سے موس وع سج تم ولوق نا چان 
وشن کے وای :(۱ خاش نکی ہاب سے ری ماکح بای دی عديث ٹی نکی 
بان ےتک عامل ينس كرودسيدنا سول له ياس وضو کے ے ان اورضرور تك 
نزي عاض کی اکر سے تھے ,ایک د ضور .ف ارنشادف رماي كسك کی انہوں نے 
کہ اک ںآ پ سے مہ راكنا مو لکرجنت شآ پگ رفانت اضيب وقسال او غیسر 
الک قال هو ذلك قال فاعنى على نفسک بكثرة السجود )م (r‏ 
آ پم فر ایا ای سلسو اوربك سكو بول نے عت کی اک س لوال ی اکا مول آي 
ایکا پل سکن ںکڑ جو ےت مرکا دورد 
واپ:- ال عد یک میں ما یکا ہے 7 امغر عادى کا سوال ے یل جیما کہخود 
٦‏ تحضر تل کے جاب فساعسی ےنام ر ے۲ ,]خضرت 9 ےا کی خوش کے 
ما مو كاط ریت ہا رشا دفر مایا ستناب كراد لور یکر نے سے 
سح استيرلالة کی درس تہ حل ے۔ ۱ 

ال پارے يبل خضرت مولا ع خی مجر صاحب مل العا نے بدى ای وضاحت 
رال ےک ص یی نے ورال سے ام خی رعادی جت شس رفاق یکی ورتوا سس تک ےر 
كزشير هفل دار کہ بیصورت اتد ادك 1 ولتم عل دائل اور چا ے | 
1 فرام وس مطل بكاوره کے مطا بن بھی ےک ج چز دس کت میں دواگو 


راون بت قاری 


لمعي 0 ۶0ت وت 20202902902۵0002 و زو و 3 28 


نہ کہ جو چا مو اگوسب ہمارے فعض یس سے میں ال عد میت سے هضور مک قضر 
ل سب یگ سے ےآ پ سکوج چا ہیں د سے کے ہیں بالكل غلط اور نی بیدا یط ها 
خيال تھا يكلم نبول سق ريده حال سےمعلو مکرلیا وكا كال وق تتضور يرخا صسكبفيت سے 
جھ یھ ما تک او تن تی لی تضور بتك برکت سے کے عطا خر مادمیں کے چنا تفر کا ره 
کا مک کر کو سے یفطل سيق عل می ری مد دك وال با تکو داش کرد ہا ےکی - 

:رگاس ت کا پوراکرنامیرے عطس یارس پا جن کے لے دعا ماد رسفا گر ف كوش 
کرو گان می لکش تود وا ےکی ںاور مک ڑود کون کرت ہنا کر پ و 
انفیارتام متا وان قير ضرورت ی _غوض جلت وروز می تج ےکا اتا ر ہیر خا تیال کے 
"كاتس ءرال انبيا ينم السلا مادراولياءباذان الى شفاعت اوروعا مین کے ل كرس سك 
جود پارا لی مقبول رازن رات کےا از قر بک وکل موی _ 

ر ہیی کی تھ کے سوال سے اتی بات معلوم ہوک سرن رسول ائ ا رتش 
اوقات الى عالت مو یک راس وق تآ پ جس کے لے دما فرہا کے تھے وہ لطو راچا کے 
ول ہو ہا ی نکان ردام واسترارضرورق ے اورت ا لحاقت نٹ یلال جبيرا كم 
مور نی می لك راج 
ف هو -اورای پار ے تیدا جح ث دبلدکی او لان ار یک عبارا ت کا بھی بجی 
مطلب ےک اس وت تضور واو ہے لاقنت ناض تروص لت یرس کے لے جودعا فر 
ديل کے ووتبول ہو جا ةك »پا دعاء وشفاعت کے سوا اشقا رتا یکا حاصل مونا ر مطلب 
رت صاح بكب برچ ترایز خا ہرک قدا رگا رود (افعد 
لمحات جع ۱ص۳۹۰) پان يروددكارخوة کے لفط ےا کی موی ہے ءاو رکنابانجا رش 
رت تی نے 1١‏ ك یچ نی وا كديا ہے ال میں نر ےک ہقادرمخفرتقن 


BERGHE جا ور جد‎ TE 


٠‏ اضما وي نک کف الیغارن 
چو 5 35 5 وع غ 15 15 895 35 55 


72 


وه وه رو سس رس 

تا سكسو الو لبس مفر مات ہیں : 

انشا نا وتر رت وتصرف راکو لک درقوراندنہ ہنا مک زتره بوداتدوردثياو( اعد 
لمات رع ۳كضص۱٣)‏ 
اذیا واولیاء” حل دام وشفا عم ت کرت ہیں :- یہاں ےکی معلوم کرت 
جس استمد راز مات ہیں وی سے لوق لک ے اور ہم نے ا لک وک رصور نہر 
> کیا ءا سکوعلا اب شت کی كر ست پا کف رمقلدفرقہ وہابیرے۔ 
(۳): خاش نکی ہاب سے دوسرکی عد بعش <طربت عثان بین طیف خو کی تب لكل ال سے 

سک ال ےک ایک ناش در پات حا رہوگ را بای كبلك دعاءکی 

ورات کی ءآپ نے الکو وضو کے پور وو رتسب گرا دما وکو پٹ نے اورا کی طرج 
وراس تک کم فرب 5 
الله انی اسئلك واتوجه الیک بحمدٍ نبَىّ الرّحمة یا محمد انى قد تو جه 
الى ری فى حاجتى هذه لتقطى له فشقعه فِیٗ - 

قال ابو اسحاق هذا حدیث صحیح رواہ ابن ماجة فی صلوة الحاجة 
واللفظ للمّرمذى وقال حسن صحیح وصحخه البيهقى وزاد فقام وقدابصر 
(ابن ماجه مع انجاح الحاجةص ۹ 46 


جم :ساس الث لآپ سے درخواس کرت ہول او رآ پکی طرف توج ہوتا ہوں بر 
شی رمت کے ءا ےھ یه :می ںآ پ کے دسیلہ سے ای ال عاجت يل اپنے ربک 
رف وج ہوا مو لت كرو هلود »وه اسان :اب عله كشفاعت مير يتن لقول نک 
اب:.۔ الل صد بیش استمد ارف پ راز ک‌طر گنل یرال میں 


نو خداتزاٹی سوال ہے بواسطہورسولاکرم لال کے اللَهمٌ فش فعه فی-(اساش 2 آپ 
۱ مل 55 5635 585 55 8۵ نت 


اون كركف الضاري 


عےأ ہووت 19و 15 :19 15 :3 5آ 32 15 15 دوغعدضج٭جودوع٭٭ے<وعجوعع و 
لچ کی شفاعت میرے باد لول فر ہا اس مل ہیس طلب شفاعت بالكل طابر ستاو 22 
ساق يسمش لوقت سل نت میں »پاک ال لآ پکونداء ساق رين قريب سول وہ 
أب تي وی می دعا اکرر م تیا تضور فقا ريب ہی وبا لش ريف فر ك- 
اشكال :- یہاں ایک اشکال ہوسکتا س کرای ردك ردایت بل ےک خرت عثان 
خاد ے هروا تیک ای کو بیدا بصینہرن مف راق ے۔ 
اپ (1):#ب نامك د در ائم می وال ہ ےج کو ہم کچ یں( مراک را ) 
چوا ب ( 1۲ رانا مطور اصو يكلس کےخلاف ہو نول سیا لی بجاو کی چا ہے 
اورہصھا کی تاد یش پول ہو کیرک ای سے اوی ی ہو ہا کن ہے جی اک 
یح ا كرام وصا ل خموکی کے إعدتشه دكن السدلام علیک ایا التب یک با ےصرف 
السلام علی الب (تن۸ظء) کے تھے( البار ی۷۰٣٣‏ )چنا عر ت کپ رالد 
بن سجودری الثرعد سے قول ۶ی۶۸ منصور عن طریق ابی عبيدة بن 
۱ عبدالله بن مسعود عن ابيه ان النبى صلی الله عليه وسلم علمه التشهد فذ کرہ 
قال فقال ابن عباس انما كنا نقول السلام عليك ايّھا اب اذا کان حیا فقال 

ابن مسعود هکذا علّمنا وهکذا فعله (رالقدی ۲۷۰۲) ۱ 

ديقت حوال شرع کے وان قي كا قتا بھی مق جوان سی کرام ے 
کیا لکن علاء مہب نے تہ میس اس تیا كوا لے تر کروی کہ یہاں تضور اكد 
لناپ ديا ےل ہایس دنا تھا السو ل بلغ ار وهآ يات ع آتخیر بد ام 
یں اس یع دنرگ كياكياء چنا تیان و دواعلم بان ابا عبيدة 
لم یسمع من ابيه قلت قد صحح الدارقطنى احادیثه من ابيه فاما ان تبيت عند ہ 
سماعه منداد عرف ان الواسطة بينهما ثقة۔ 


اتقاتاي و و و و و 5 5 52 35535:3355 33513335 :13 113 3 2 3 02 11 07 3 ل 
اکال:- با ری ص۹۲۹ میں ع بدا بن حور ےت قول ے فلما قبض قلنا السلام 
اب :ا كوي داقع جز کم برو لکیا اد ےک ہابت اء یں ق اٹہ بن حور یودن ىا 
مھا رک رح یہہ خلا ب ےکک کیا تھا كاذك ارک شريف میس ہے ہک ہگج رتا ور 
کے هریش + شطا بکوا تی رف مال الک باریس ہے لی تخر ند اس 

٠‏ نی زحضوریلی رل وم هتخپ دک یلیم عام را اون فیا زی تور 
حيات مپا رک شش" يقي اعید ونا ب تاس ےکی تشہد یس نداءكا جوازت ےا ہے ہوتا 
ےط اححضرت ابن حورا قول یادا قو ج تی کو كياج كاي کہا جات ےگاکہابتقراء را 
بن ود ری ارعش سنا كرا مکی طررح سین خطاب رک کیا ھا كاذك بفاری 
ریف ٹیس ہے پچ رتا لل دفور ولگ ر کے بح دصیف خطا بکواخقیارفر ای سک فصیل الباری 
ٹس نادس سرا چرس کم يهال هد یٹ ای تشہد کے برابرامتنام ونم تن ناس کر 
ال لکوم ق کہ ہراب وعاضركوا نکم د کل بو اکں دعا قياس کے الق 
عیضہوندا مر کرد ٹسل جحضرتعثان بن طنيفطف ے جووضال کے بعد ييدعاء 
بصیفہوندا صلا ده پک تاوق على ول مول ارت تا و یل گی ۔ 
اپ( ۳):۔علادہ اذ یرال ول کی روات سے تبادر ہے موتا ےک حخرت نان بن 
یف نے وال وی کے رصق کوب لی فر ما تھی ا سکس نی یں نماز ودعا 
عو یڑ ےکا ذ رای تمافقال له ابن حنیف ائت المیضاة فتوضاء ثم ائت المسجد 2 
(ائجاح اد ٠١١‏ اور وبال سید رسول الق اب ز مان و حيا تک طررع تش ريف 
7 ا تذ ا صصورت ھی تدان مب از - 


لٹا وي يكرك اليضاري 


BEDRE 96666569555555 555 5۵ ۵۵۵ ۵۵۵ 014‏ دواع 

چواب(۳):_اوراگر ی نے سنوی و 1 82 نے لف ترا ۳ 
ايارع لف وارراستعا لکہاہواورنراءکا تر د +وجی )تشه رارق کا فص ہوتاے کر 
نراک لی اک تراک دوس کیم تشز راء يل ہاں جوندا اف قيال وارد ہے اقتا هد بیش کے 
اتا کی وج سے ا لام کے استمال ۳20 نیش مكرما مطور ےجود وم ری هلمرا ءمرور ے ۱ 
اس می کی سکااحاح سب( تن افاات مو لا نا رج صاحب رل ) 

جواب(۵):-) ان بن عطیف خن سیل برقي سکیا جانا ہے نو رق کر بھی بی نہیں 
گنل خودخلاف قياس اورقائل ماد يل (جبيرا یگ راب جس پ سکس 
اودانہوں نے و لظ حب کی انا )کہ نے ہو دم يف نتفای 
دوسرئی نام کوک ے ٢الت‏ جبال هد یش وق رن میس ضیف وندا با وال کے جواز 
کے ھی تال ل ندا وتات 

جواب (٦):۔‏ رس رسول ای علیہ یل مکی خدمت می ؤسلام داسف کے 
لئ فرشت مامور ہیں وہ اس دما مکی تضور رل بقل خدمت اترک بیس ناويل گے 
لوز احضو ر ادل بو کے واک اورکوندامرکر ے ہیس تو ای میسو ا وم كوس موق 7 
فی کی اور کے ے جات بل 

22 ٣)ز‏ ںی رش الف دخ ہکی مد یت یک جال بش یں راس یھو لے وا ےلو 
ياعباد الله اعینونی (اے الد کے داوم رک مددکرو) کل کم ے۔ 

جواب(۱) عر مخت یف ساو رعيرع تیف ےا بات کل ہو ے ٢‏ شیر 
وه سول شرع لاف واردبول عرزي گی نے شرح جارح صخ ريغل ای مد ی كب الث من 
تور اروت کر کہا ےقال الشيخ هذ احديث ضعيف ( ال ۱۰۵) 


12 935 53595:2553 5:99 


قاری يكرك نيضار 


SHH 
0 اشکال:‎ 

جوا ای کس رن ل نات ے نے کے اعقبار تنل سے 
رشن تسین مرول اور تہ ایی پول نین انات اکا م کے ےکن کوک جن 
مل نا تم دی نکی طرف ین ضو بک ای ہےان کے نا لول ہیں - ۱ 

داب ( )جازم کت جواب یمس كمال صد یت بل نداء ذا حب سے تیال 
وکح بث سے اننا محلو مون ےکہ ہما ند رش ما زرا خاطب سک 
رل یں مون تصوصا جب لبحب الث ہو ورک اق دع نکی ردابیت ٹیل ا یکی ر کاک 
وداش( ائ کے بتر ے ) نل میں ہی حاضرہوتے إل كما فى الجامع الصغير فان 
الله فی االارض حاضر يشهد عليكم رزیل عاض راك شر می لكل بل 
ای خلقا من خلقه انبياء اوجنيااو ملكا لا يغيب (ص ه١ارج١)(نثق‏ ال كلوق بل 
سكول لون ایبول با نتن يا فرشت مول ذا بال ہوتے ) ابو ک‌طرر ا ںکونداء 
ابا 

كال :یلین ممرعال ال مد یٹ می كلوق ےطلب استوامت و مو جودے_ 

چواپ :سپ راستعاعت زم وق سے ع ءامورعاد يل (جوعادة تر رت بش ری ی جن اي 
یش ول ہیں مشلا بها سك ہو سے اور روک د یناکم شه نوعط شرا راست لاد ادن 
ادا ماد سف ديك چا گے (استهان کم یھ ) 

ول (۴):۔حفرت نی انها لاشعار الایا رسول الله كنت رجائنا الخ- 


جواب:۔اگرا نک توت بقاعره رثن بویا ےت کن س ےکراتہوں ے روضماثرل 7 
مارد پات بول یس مسب ی 


مقر نت گن یضار 


0 68-2-9 ۵222292222928229 225 ود وود :40 149 15 :9 :18 12 90 195 89 19 19 33918 5 9و 
هوق وحبت کے ل ےکی انا ول ول فا سے ہے جو ان سے 
جيرا لژ را 
دل(۵):-سی پاک ئل ےاذا تحرمتم فى الامور فاستعینوا من اهل القبور 
اس میں جواز ات تین ابل اتو روا نم سرا ل‌موود. ۱ 
جواپ(۱):۔ال2 یعد ضیف ےا لل بقاعد: رن اب تگیاہاے- 
جواپ (٢):۔‏ بجر اوت استعانت سے مراد وکل ے یں مطلب ہے ےکہاموات کے 
سيل سے دعا مكيا كرو اورت اموا تک مج الباده ے جارح میس كب الث بن تور رت 1 
قول ے ان الحی لا يوء 7 عليه الفتدة (لرزئدم1 دق نتا انم يدر ببتا ے )اورجو 
لگ ا یمان پروفات با كك ول ان يرائد یش - 
جوا ب( ۳ ): د یہاں استوانت سے مراد یہ س ہک ج بک م کے امرخ ب يقال ہوا 
زی ارت و دست اعات ما کی اکر هبو ال سيم لوآ وک ا و لم نت 
امال صا کی طرف ریت ےکی اور رتست ال کا سیب ہو جات ےگا ل‌صوررت ٹیش ای 
صد کاو عأ ل ہوگا ۶آ مت و استعینوابا لضبر والصَّلوةكا > 

ول (۹):۔ امام اباي ذكاواقد بلاج سک وف مطار پر جاتے اوراس 
سك درواز چھاڑ ود سے اوراورو لاش عطا ۳ سے اوراما تفر سے ا ےکا مؤں ٹیس 
اسعتعاشت ما لكر ے ك- 
جوابپ 6 ب دات موضورع ےب ال ماعل وتز ماشہ مج دن و 
تج کک مزاول جاورول کے رورا كوش وره دی ےکی بدحعت شرو ربل بو 
ی جوواقدس کی ای ہے۔ ۱ 


اضر اوي بت البضاري 


١‏ عق وفع هو هو جع 2 ج221 5710 9:15 2 و و مو و جموو وج 9:1 8 8:15 5 0 ا 2 98 0 919 2 و 


جواب (17): اوداك وت بالف سند يح خاب ی موا ےا تخ عبرا کی تر کے 
مطا بل میا بھی استوا ترت سے مراو لت لیکو الن کے نز یب استات وستمد ادك 
مطل ب صرفب س ےکن تھی سے وس ده مقرب دعا کی جا یا ال بن دہ مقرب سے ہم 
` ر کیاجا ےک و ہج نت الى سے دا کر ےہا لوک ی مہو کر ے - 
رمل (ے ) خر تورث الم رجن الط رف طسو کیا جا تا سے من استعان ہی 
فى كربةكشفتُ عنه ومن نادانی باسمی فرجتٌ عنه ومن توسل بی الى الله 
تعالیٰ فى حاجة قضيتُ له رت توملا یکی سند یا نی سک کی نز برة الانثار 
ر سيور لکیاجا٤ے۔‏ 
جحواب (۱):۔ بعد يش ضعيف > اودبي بات او رتاوم وی سک ات اکا م کے لے 
مد یٹ شو کان یں »اور ار رمث ضوف اصول شرع کے خلا ف ہو اس بل بی چائز 
یں چ را واوليا ء وم ار توالی کےا سے اقرا ل وافعال سے اکا ماشو کیوک مرکا ے جو 
بلا ست ر ہوں ہا سن شتف سے ابت اول 
جواب (٣):۔اگ‏ رح نکن ےکم لمح بعس اكد مانا جاح تو ان افعال کور ہکا 
مطلب یک بوک پیت میس خا تقال سے میرے وسیلہ سے فریا کہ ےگا ا کی 
معبيبت دو رہ وجا ۓگی ء چنا نی قرو سل اراس مطلب برق ینا ہرہ ہے ہل ئل عبارت 
مل کشفت فرجت +قضیت لعیفہ ہم وک- ہیں بصی میں ا سکامطلب يچ لش 
ا يل مصیبت اوركافت کے ال ہونے اورحاجت پورگ ہونے کے لئے ورپ رای ل دعاء 
وسار کرو لگ 
ادرنادانی بساسم ىك تب ص رفي ےکہیبر!نام سرخ داتعال سے دعا سیک 


3333 333323:35: 


. الغ وي يكرك لیضاري 


سے ور تک 9 BH‏ 
عسل و لی سے فق كل ہے اور ای لصوا لتقي غا تدای كيا ہا تا سب چنا رد وی جر 
الفاصاف کور ول ويذكر اسمی ویذ کر حاجة فانها تقضئ باذن الس مرانام 
لن را بف عاج تكو كك هاوه خداتھاٹی ےم سے نورق ہو جات ی( رکا تض۹) 

وغل (۸): ایک دا 1کرکیا جا ے ےک حعقرت سر يدول نے ایک مر نوا 5 
جل ميا شيخ عبد القادر شينافة/باتها - 

امب (1):#اس مس اول ت سن رکا مطالہکیا جا ےگا ور سند کے سا تھا ہت ال ے۔ 
یقاب (٢):۔‏ دص رین ےک 9 نے غلب شون وت ے ا کیا تک لصیشہ ‏ نداء 
استجا كيام جو چام ے ءيا حا لمت اضطرراریس ایی کات بلا طني رصاور ہو گے مول ءا کا ہے 
عقیره ري تی لحرت ا رونت ریک ےترام سن ہیں اودامداوکر تے ہیں۔ 

او رال مره کے لئے ایک سفیر اک ا جرمونا او رش ره اون کا تلا و با سوا لک تقیقت ايد 
وی جک ذک الہ بحو کی روابیت ک تشاد رح زک سے او ركذ دييكا ےک الد 
تال یاون میس سبتض عر دا رت بس١‏ ےا مور کے بتلا ے ب م ضور ہیں او روو كل میں 
عاضر سنت ولیک ال شو تیر ندا کے بر لطي فى سے شل ساك یراداور 
کزامت ہوگئی گرا کا نہ دوام ضروریی ہے اورنہ ہی ظرت اسك افقيار عل کہ جب 
پا اسك اعدادکریں۔ 

و مل(9): سیدگی ارم زو یکا ول کی ماج کزان 2 .۶۹ 0۸ 
سوال پرفر ما کہم رے نز ديك می تک یدمک سا نے فرمایاکہ پل متا 
ہ ےکیوکددہدد بارا کیاے۔ 

` چواپ: ما آوا توا رت سے بك سالک بيبال اعداد ے افاضر روعاف مراد سے 


وہڈوو وج وود عجعیتءموحوتچ 


اغا ری كركف البضاري 0و 
5 12 0 2 هه رر ون و وود هوجو وود و رز و 18 مم تس میں 
اورامراد ست افا روعا لی بلست تل ہوتا ہے او رتم ا سکوی مک کے چ ںکاولیاء اید سے 
وذاث کے بعد( جوش رازو صوص کے تھے اس کے اال ہیں )ا نکو روما نی ٹیش صل ہوستا 
س ا ترام کے ول گرا نکوعاحت روا چا باه ے پا خودان سے يكبا جاه ےک مارا 
کم باق ان ےس لک نایا نکی روسائييت ےن مال کر ہم اہ کو نی كرد 
ول (١1):_جناب‏ علا متضى شيا ابل رصاحب إل يق نہ دشیم ری ےعبارت 
نفک ہان کہ وقد تواتر عن کثیر من الاولیاء يعنى ارواحهم ينصرون اولياء 
هم ويدسرون اعداء همان 7 

جواب:۔ ا لكا واس لصاف طابر ےکہادلیا اللہ سے ا نکی وفات کے بح رک یکر امت ابر 
مول سے کن شزرل اور وسیل ہدتے ہیں اي طاقت سے بكي كر کے تمل میں نع 
تصرف واد رص رف تق تھی ہیں »ان تھالی بی تہ رت سے ا نکی اروا ع كوظهو کرای تک 
وسيل راورزر ناد ہیں نل سےا نکی وفات کے بد یکراماتکانھہورہوتا سے بل اولیاء 
اش سے د فا ت کے ورگ راما تک ني ل 47 )ا رل - 

ول (١1):#بجبروال‏ فال ضرت شع اوسر ند ف سره سكوب ست ايل عبار سل 
گی جالى ہے جن کا عاص٥ل‏ ب ست كراى ررح الل حاجات ان دول اوروقات بف زيول 
سے نظ ناک توا دث میں روط ل بكر تے میں اور يود گنت می لمان زو نک روش ما ضرمو 
كران سے بلا كود ف لرديق ہیں - 

اب :۔ اس می ںبھی بعد وفا تكراءات وخوارقی کےن ہو رکا ان ہے ایرادطل کر سكا 
مطلب وی ہے جو رفن صاحب نے اسنتهانت واستبد ادن ٹل ین فر ما چن ده 
ان کےا وسل تن تھا یکی جناب شل اداد کے خواہاں ہو نے ہیں اود یی مطلب ہرک کی ںکہ 


33535 12 18 25 9 9: 35 36 15 1: 15 17: 45 12 


اون فک رش الضاری 


توان سے ما چات با کے ہیں اورارواع خود بولق نيل 
فادػ:۔معلوم ہوا چا ےک زات کے بار ہی تی تخا یکاصاف اشادے۔ ومسا کان 
لرسول ان یاتی بای الا باذن الله کی بی یس رطاف ت كيلك وهبدو ل غداتقالى سم 
كول رل کل ليام سکب بیطافت ےک دوٹووکو كرات نس ام یٹس 
کی اداد بدو نم را وتر ككل سيل صن فی الات والایش ای سے تنام زمین 
وآ سا نوا سوا لك سے »بل استعاشت واستتد ادا سے مول پا سج ہاں مق ربان با رگا 
سا کرک IZA‏ ۱ 
ول (۱۴) :دار ارت شک جال چا کاحاصل یہ ہک جب ک انان 
کول یر ضا ہو جاۓ اور وہ چا لقن تال ات ای فر مادمی سذ اگوی ہی ےک ایک 
ا گی م روش (ا رین علوان ) رف ماكر سکیا وا ہے کی کسی ری ام بن علوان ؟ 
عير یآشره جز شك داج ل کر دودر تم ستہارانام دض اولیا مائڈرے :کال الو تی ص) ۔ 
خواب:۔ مالیا کی ےلگ نکردیا سا ںکوعلام شا یک فق بک يكل غلط کی 
ا صورت می ایگ ول سباتھ بس فد ركتا فى اور سبهاد لی ہے دہ کی عاقل ب ليشي داش 
لا وض ایک وٹی سے انام یکر اک یکو بھی دس ےک اک ایا کرد ےت يار 
ام اولیا ءاش سے لی دو لک کت کنر ہے علادہاز یں علامشائی نے تر کی 
سكم اولياء اهتضرف کچھ کفرے ومنها انه ان ظنّ ان اقميت یتصرف فى الامور 
سن دون الله واعتقاده ذلك كفر ( ص۲۰۷ ,)اور عبرا اشع لمجا کاب 
الجبادث ل فرءاسة ہیں: 
ونيت انناں رال قرع تضرف دآ اکنو كمد رقودائدش با مک زد و بوونردرد ۱ ۳۰) 
یبا اج با 


لم جا جا یر جس وج موووووو 


اظ وي كركف ضاي 


وج هو 22 ده 622222222289 2٤د‏ 6355355۵5 35566 55 ۵5 HEPES‏ 5 


چا تول کیل میں ای لکشف وتنا لک تب سے او رال س ت ر7 شيف بش تک 
رر یکی رکھاجاتا ے ريدمل جوازل- 
وی( 6۱۳:- تیزم الم یکا یق لكوأ كياجاج ےکہ با حبدالتاد رکا نداء ہے اور 
تان مر شین لله لاد یا جا ۓ وال يل دا کے واحل ایک چک .ئلا برصلا اس 
کرم تکاکیاسبب ے؟ 
جوا پ:۔ د رتا رش ے کذقول شی لله قبل يكفر ( ل دع ارخ ۲)ای‌طرر‌شیثاله 
سے کدی کف رمو جا تا سجء الي علا مشا ى ب کر کے ہوم فر مات ہی لل ينبغى 
اوي جب التباعد من هذه العبارة وقد مر مافيه حلاف يؤمر بالتوبة والاستغفار 
وتجدید النكاح لکن هذا ان, کان لايدرى ما يقول اما ان قصد المعنى الصَحيح 
فالظاهر ولا بانس به( ص ف ع ال )بی منزاسب بلرواجب ہے ےکا ہے لفات 
ارا کیاچاو کول يع لک چک ےکن الفاط ‏ ےکفر ہو نے مم اختلاف ےان تلو 
واستغفاراورتقچد ید کرک کیا ہاو ےگا کان ب ال وت ےجب کین وا کد نوم رک 
می سکیا كبر امول ( اورا كا مطل بكيا > 327 می ( لوجانتا ےاورای )کا تک تا 
ول بابرا م2 ال »الل عالت می لكوامكو شيسشالة کن ےکی اجاز تكوكروى باك 
سے جو تی اورغا من میں فرق کی نت ہیں تضو اراس کےساتھ ب جن عالقا ورج 
نیرگ ملاد یا جا اس وت كفركا قو یات بے حطر ق ای نيا ءا دصاہب قد سرد 
الاب ارشادالطالنین یں فا ہی ںکہ: 
تھ جبال مود یا چنا عبدالقادرجیلا لم رح ال علی شال یا ےی 
۱ إل شیا لل هكف روات ات 
کین وا حطر ت تم وولو اعفاد کے ترا کے که 


جو .تیور رح و رج و 18 5 :9(8 18 218 3 


2او تن لئے الیضارق جو 
51 5 25 15 30 شش مات 32 30 139 ا شب اف لت :82 115 145 115 85 نا 85 19 قیفر و انتا 
وه تصرف ہیں سب پھر کچ نإل »او جولول ا نکو ركارتا ہے ا کی بات ہروفت عن ہیں علامہ 
ایا سرا ہیں جیا ا كماو ركذ راکو نانوی ری مر« تنأو ل يا 
شيخ عبد القادر جیلانی شينا لله کے وی کن ہت ارشادف مات ہیں:' 

ا نا از جب تك ای ويف مان است ترا اموات را از ام بد وشرما 
مت تس تک اولیا مراف رن است لماز امک بھی ہ ترا پش رند ایس ماع اموا لام دا مقر 
راغ بت است پ ایک خی رق سبحا مرا اط ونار دعا مف وی در بروفت دہرآن ات 
اقا داو رک است :در وک از یا سیر وخ بل ر شور وتال داس ورسول »خر ا دفر شمان 
ر وكواء کر وم یف لماعت ان الرسول والمک عفان الغييب وتال علا یا کن قال ارواحع 
اقا عاضر تلن یک ای ء وحضرت تم بد القادر اہ چ از لد اولياء امت اقفر 
وهنا قب وفضائل شان لا تحر ول انان جس قر رت شا نک فریادراازامکید مر پر 
وخر یا در شر ٹا برت تست وا عاد ريل اباب بوذت حال مر يدا ل خودهيرا تند ونراے شان 
ہے شون دا عتا ترش رک است ورام( ص۳۳۱ ۳ الام ) 

وی بزاز ‏ یک عبارت سے یا صافڈر روا من موكيا کراروارج مشا کوحاظر 
وناظ رککھناکردوسب بج با سنت زفقي گر »ا کید ول وج ےگ یسا شيخ عبد 
القادر شیا لله کے وہس ےش کر تے ہیں اوداك تمت کا ف ی د ے ہیں۔ 
نل( ۳ کی ق کیا جا تا ےک حر کوب عام اسف م ريدو ںکو بد از شیا نفد یا 
حص رت سلطا ره رم ال علیہ ایک سومرتہہ پٹ کی اجا زت دياك سے تھے۔ 
اب :اکر کی بد ر :انل شر يعت سك خلا موم ےو نکی بنا ء براش س 
تاو لک کے انس کے اتج ہما سے ردکا چاو ےگا اح فی وال تال سل 
كتاج نکیا چاو ےگا کب وک اولیاءانشداتاح ش رجت کے ما مور ہی شرلجت ان کے افیا ل کے 


عق 4 0-6 6 AOR‏ ےچ جج عق 


زا رت تفج رن 


01000200 ده هه وه 6629 کچ وج جج ئ2 

ا یں لیں ۷ E‏ 
نے اس ندا ءلوغليه وتو وبحبت بو كر کے جات مھا ہوا درن مر یرو لوا سک اجازت وی 
ہوووان نو يك خوش لعقیدہ ادرخون جم مول جن یت ان يشمت توا كي لوأك ال 
تام ٹیل رت سلطان کے تصرف وحاض رونا ظر ہو زک عقا ريل کے :مین ال تاو لكاي 
مطل بن كان فانک امتعال برض کے سك مات موگھا ءا لكل اڑسی تال سے کی کی ۱ 
مرك سے بقل وک نبول نے ایک مرج هیال تسوا سے کی نكو ريف ای ۱ 
اک سک راکنا اس جللہ ہرعائل بی سكا لهمي ا مانا ترام س کون رگ کے 

پا ںکوئی فا ہر یا بافی ت یا موك جس سک وجہ سے ا نکو یقن نک کر رما فقصان نہ در ےکا 

ال انہوں نے ایی یدرون کے لے ا کا کھاناترام ہی ہے۔ایط ریا شيمخ عبد 

القادر شيا لله کاوطیفہاگ سی بنرك سے قول وتان لفل عل تاو لك چاو ےکر 

دوس و لوئ نی لیا جاد ےگا اوک را کات کے کنو ہو نے کے لئے ری موقم ہو بھی 

كان ہے اکر چا مع بھی ہو کے ون »دقن پاک تسار مرول الف 
سل اش علیہ یلم کے ےر اعا اکن ےئ فر ماگ ا وال کے معن اکر عليز بان 

یس“ ار یتک رعا ت فرمای' ا یھ ہی ںگر يبود یو كل عير الى ینس اس کے ن 

برے ےکوی برراعنا كاكلا ینعی کے قد سے تق استعا لگ تك اور بر ےت یکا ان 

کے عا شی ءخیال مل یھی لز یں ملا تھا رپ ری یہد ول یکا وم1 2 

رورا لو ا ی اک تھے اس 2 ا مہ کے استعالل ے اک ی کے 

ققد ےکی روک دي کیا عم ہوا ہاگ ری و مرا ےکوی روما سند ن ےک رخلاف 

شرع ی کے تد ےد ی کا کے کے ت اتل مرا كوي من کے قد ےکی کر 

چاو ےگا فام رتاش كدعا بمقعد العرّ من عرشک نوع ے۔ (کا 


3 5142 مع 5 :4 2 5 5 5 35 5 2 جا‎ E 


اغلا ري بت رتفي النض اون E‏ 
9 9 و 5 5 5 5 3 5 5523 32355353355 532 5 5236 5 53 2 122 3 3 3-133 و 
ٹی البدلية جع ”ا ص۴2۴ علامشا ىال کے کت إںلان مجرد الايهام كاف فی 
المنع عن التکلم بعد الکلام وان اع سن یهن 

وف نزور وكا کي تی حال سک موم نشرک ہو ن ےکی وچ سے ا سلؤ ليا ماو > 
6 یرآ کل عام لوگ استات واستمد اداد نداء ٹیم رنڈ میں شرك وكفريك بسن وانے 
عقیروں یں بنا ہیں »ال سورت تن ا كما تک ا نکوکیو لكراجازت وى باقن 
ٹیس ا رفاظ ی سےا ببہا مغر موتا ہے۔؟ ال ہما را ملک ہے ےک ہم سارت وای اد 
وندا م روج ہز ماشہ حال سے عام وخا ی س بآ کر تے ہیں الت توس لكو از كت ہیں جن سکی 
تق راو ړز ر یی ے۔اوراگر بز رگوں سکول ات ا لم مکی ثابت مول ےت ارا نکی 
ولا بیت تلم رهق ان سے کل میں تاو م كرك رگا كوان سے ر کرد سيية ہیں اورم 
شر نل کی طرں تب بی تيرك ست 

والله هو المسئول لان یثبتنا وايّاكم على الصراط المستقيم ویرز قنا 
وجميع المسلمين حبه وحب نبيه الكريم وحب اصحابه واولياء الله ويجمعنا 
معهم فى دار ال والحمد له وحده وعلی سر سم الضلوة ات ۱ 
وعلى اله و اصحابه واولياء الله اجمعين دائما ابداءامين» امین - ( تل عیب الث 
على يور ذى القعرع۲) 
سوال تاب طالب لم :تيم مت مولا نا افو رم اللہ علیہکا ال ہار سے 
یم سکیاخیالے؟ 
اب :لم الام تم ول نا اشر کی ھا وی رقة ا رعلیہ نے اس سل پوادرالنواو ری ٠‏ 
اقام استغانت يول ینک 5 
(۱)استوائت واستمد او باعتا عم وق رتل مستمد مد و ووش رک ہے۔ 


سو یم 55 55555 56 55 35 


لااو ني كركف التضاري 


eS‏ هه رو و کے 
(0)لوريا عت جم وقزرت یر تخل ور وب وقد رست کی ده سےخا بت نہب حصیت ہے۔ 
(۳)اورج عقاوم وق رمت تیم سل بواو روم وقد رس کی وکل سے ابت ہو چا ےتوہ 
وہس یملز ند هو یامہت- 
(۴)اور جو استید او اع كلم وق رت ہو تخل تیم تل ,بیس اگ رط ری استمدادمفی ہو 
تب بھی با تب استمداد بالنار والماء والواقعات التاریخیة 
(۵) وگ دلوت 

يكل با مین ہیں بل راستمد اد ارواحں مشار سے صاح بكشف الا روا کے 
ےم جااف ہے اورغی رصاح کف کے لض ان ترات کے تو راو ر کر ےم راع 
كركلا تاوكس کے خیا لک نے سے ا نلاا )کی ہمت مون ہے اورطر الل مفيرى سے 
اوریرصاح بکشف کے لے برو ل نع کر وتو دمک ہے۔ 
سوال تي بط لب :ا ستھانت کے بار ےش وتاش دارا ح گنی 4 یاے؟ 


چوپ :ایس کی پات ہو یکی ہی لك دما اس ہار سے میس ان مسائل 
مولا نام را رحوم وبلو یکو کت راب ره وال كيا اس شراب دبا 
جات ہے۔استحاخت سکن تن ہیں 

ا اتی تعالی سے د اکر ےک کرم قلال مراکم کرد ےہ بالا تفا ا ہے واوعند القهر 
ہوخواو ووش ری تکاس مل كوك من ۱ 
پ4 صاح برک کے برد یگ نورق رکے پا نارق ے دور 
کاو رن رواب بت ل وآ پا ےاعینونی عباد الله وول الوا نت ے اسیا ت 
یں پل عہادائشد ضرا بل موجودہوتے ہیں ان ےطلب اعات س ےکن تقال نے ا ناو 
1.۵1 ریا ےآ وہ اس باب سل ہے ا ںکوجواز مت لا نا حن 


35 5818 93 533 335 555 55 939 


ار کرک زج ان 


2 36555553555553 535555555 ۵553 55 ۵ 


مدعنت له 

9 ترسك يال جا 0-0 سے وا حل دعا کر كات نالیم را کا مکردے_ 
اس میس علا ءكا اختلاف ے ہجوز سن سار مول ال کے جواز کے قال ہیں اور مين سا نع 
کرت ہیں سوا سکافیص کر ال سكا نبي يم السلام سار كوخا فال ال وجہ 
ان کی کا ے۔ ای سل جوا زگ ول ہے هک فقهاء نے وت ذیار ت تہارک 
سلام کے بعد شقا عت اورم خف رر کا عوکر اککھھا >_بل ب جواز کے واکان سے او رکو 
E‏ ا ك 


ی تن 8 ر 5 از تال 


0 | 


حم ت ےہ ہس دع یع یہ دع ی کے ےس یر س و سو مسو کک نا مگ ا ا ت ت ا ا ا ا ا سا 


سس مو وس دس ۳ ان ل ۳ ی 


اهدی هن یم ال زنل تین قزل 
اقب چا ئل تل بد دلصل گید کہ٥‏ 2یا گے ا 


5 5955:3555 55 55 5 5 55 5 


0-0 


na ath‏ ات ات ات ات جس ای مکی ای کین ای اس ای با بای ای مها و و سوا باتع اہ سال سد 


ود 


سر سا تا تمهنا مت نمی تن تک 


تسه ی تسس ی ی هه سس ی ی ی نه هس ی ی هس ی ی ی یی ی ی ی سم ی ی رت دبس تسس سید سا اس نام الس د ۳ سس سڈ ۳ د عات 


02 3ص 


همم وحن ی ون ات 


7 089 أ یشان فراع 7 کے ہپ مک‎ ٦ 
at 2 ا و :عد و‎ a عي ا ف وو و ق ت‎ 
والحواس الباطبة و المشاعر الظاهرة. الغانى :نصب الدُلائل الفارق الفارقة‎ 
اش بت اور وال ظظاہرہ کا فان ۔ددسری تم ان وال کوائم کر ع سے چون با‎ 


ین الْحَق وَالباطل وَالصٌلاح وَالْقَسَاد وال آشاز عیث قال ۳ 
E‏ ا سرت النجذین 
النَجُدَيّن وَقَالَ وَأَمَانَمُوْدُ فَهَدَيَاهُمْ فَاسْتَحَبُوا ال عَلَى الْهُدى 
۱ اورا سے قربا اوس مالآو موم نے ہدایت دی بل نبول نے انار ادایت شکب سر ےا ا 
r‏ 7 رو را وک و زا ديل ار كم مان ل 1 و 
الثالك :الهدايّة ببازسال الرسل وانزال الکتب ء ولیاها عنى بقوله 
کے ہے ہیں ازل مر .کے ے 1 


سد دہ مس کے یہ سب ہی یی ہی و ےی نے یی ہے ہیی ہے یس ہے ید دی قاس سس وی ہی بی سا 


CT Tey وك . الرّابع‎ 


| رایت مراد سے ۔ چیم ےک اتی ی كلش فکردےاوگوں کاپ رازگ با او أن اش | 


میں یر وی سس تست جج ےس می مد سس یھ سس سس ا جد ی ی are sore taa ara‏ 


53 5 5 نس 3535 5 عم 8 2 83 32 


الاو كرك ١|‏ بالتضارني 


اس تت2 تديتتيتجتتت تلنتپییٹثتۓ 


له وَقَوَلِه eT‏ سيك 
EER |‏ مدب سرا 1 بت 


1 اوراس فان وشن جا جاق لوا فینا رانا لنهییتهم سّلنا شتا عدجأ 


ب اما زیادة ما مُبِحُوَةُ من الْهُى» او لیا عَلَيْه 0 از خضوّل 
أ الا سد یدید وو ابیت كتلعج يفالت > ۱ 


_ سوم مرو سوت هم رتست 


2 مرتبة عليه ۱ 


اما ی 


خر بر وک بو لب هقی | 
یراک دا گنت کپ ماد اکا لک کاک س کرد اور مار ےتمان تسا قاباتافاری | 


کے 5 سے عكر مس لاک ورک وَالأّعَاءُ ۳ 


اا ا سے س 


لغلا ومعی | ۹ yS‏ 00 
ابا تفر ے۔ 


اي مصطفب :ابر را تم صراط ال ناف تکک ععبارت کے دو ے ہیں 
(۱)اہرن الصراط سے والس رازہ (۴) والس رای سے ححراط الذ نات تک ۔ عبارت بالا ٹل 


HEEE وت‎ 


۱ فا وي اوق تد ار 


۱۲ 98 
سر ا ار جن لس بیان ہو کے - 
(۱)بیان للمعونة ح والهداية دلالة بلطف کک اھدنا الصراط ک6ائلعرب 
یا نیا ے۔(۲) والهداية دلالة ے والفعل منه هد یک "نانوی واصطااق سمل 
فإكابيان->-(")والفعل مضه هدی سے وهداية الت کربت استعال ے۔ 
(0)وهدايةالله ے فالمطلو باجنا ل براي ةكايان ے۔(۵)والمطلوب ے 
والامر کک ایک ور سوا لكا واب ہے۔(٦)والاصر‏ ےوالسراط تکدہمرے 
سوا لکاجوابپ ے۔ 

مسّلم(۱):بیان للمعونة ص +صسص 07+" 

ریاد دک ے اوران 07 کہ لین میس حور فل مفعول کی روصو ريل یں یا 
عم ما تکاپایا اف اداءالعباوات تو اب اہرناالصراط کے رز دوصو رتس ہیں اور 
معالى بھی وو جو کے ین خاش ےم دی تق ماک هلي اس می اور دوس امت مق امور 
ہق ا ہہ شس الام اب اکر تون مفعول اورص ای ی کے مها ىم بی مطابقت م کے 
وف شي نکامفعو ل بھی اورصرا وسنت کا متؤ تق ناش »ول ان صوراوں مل اھدنا الصراط 
ال مستقیم پل تاش ہوگااورجواب ہوگا سوال مقدركاك بار تھا لی اي بد لها 
كيف اعیسکم وٹ اب؟واکہ اهدنا الصراط المستقیم ای ارشد نا طريق 
المومنين حتی تكون سير تنا موافقة سيرتهم فی تحصيل جميع المهمات او 
فى تحصيل اذاء العابدات فى اخلاص النية اورا رفول نستعین اوربك صر یتم 
میں نفارقی ہوک فعول عام اور ال با مفعول خاش اور کی عا ملو اسوقت ال جل کا ما نل 
سے فطاع :دكا سورت بے ہگ یک ات می جو1 پ نے استها لوطل بكيا تھا ال بل سے 
مطلوب علی وا شم اھدنا الصراط کوا لک کرکیااب جب ال‌صورت می کال انقطارع ٠‏ 


هو ون جو و وود و بو و و 8ع وووو 


غ وی كركف اا التِضَاري 


می سس ہےر سوچھ بے HEEE‏ 
موك او ری صورت میں | گال انصالتقمااوريقالون > مک جب دوچ ول می کال تصالن ہو 
کال انتطا ہو اس وشت عطس ڈالا جاتا ای وج سے يبال عطف كال ڈالگیا_ 
معلم( ۴): والهداية دلالة: یبال نانوی واصطاا ی تمل فيكابيان ے۔ 

مت ؤالفوى ہے د لال بساسطل کپ را ولف ےکی چک با نااوراط کاس ہوتا 
ہے خخلق ما یقرب العبد الى الطاعة من غير ان بلجت اليه من امك زگرد 
بنرےکوطاعح تکی طرف ترب تر وم ا مہ یاکرنا لک زاب 
ےک اش تحال کن ٹیس اطق جوا و رل أول حلا یس خرو مريت اڑی چ ر پیدافرمانویںکہ 
حر ومطلوب کے انو رول ہواور بلول عیاش بلول کے تن می روح ابت موی بج 
ہے اورا یکو کے پیش نظ راكرلى متام میں خی رمطلوب مول تو ا كو براي تکیا جات ےگا 
لا راس کا سیر ها ال او رای مقام ل خی رمطلوب د برش مطلوي ولا لاو برلل 
كباجايكا عب غلطراستيتلا:] ۱ 
ره :سا صاحب ےش مور مما فی مشلا دزا موصل الط اوم راز لی اورشران 
کو زک رک کب وو دوثول متت ال ولال بلطف عل واقل ہیں کوک وال موص بل تو لف 
,وجاے اورار! لطر ان میس بھی للف ہو سے بر اشا وکوا اکان دروں ستول ل ول 
ران ٹیس ہے بک ہی کے کی اصل وش ای ترہش رک ( ورالد بلطف کے ےی اور 
وول اس قر رش رک کےفرد ہیں دوڈوں میس سق ای ک بھی دوسرا مرا ہوتا ہے کین اکر 
دول کے لع نج انی جا ے5 اش راک ناد ارنآ کے لے اھ از >- 
اقترا : _ اگ رداال تکااستعا لمع رل _عاوفاهدوهم الى صراط الجحيم مل 
مش شر مرادسجي کی ےت ہوا؟ 


و و دوجو 05 0 و دوجو موم ووووو 


زان وي فك ركفي الضاري 


جواپ(۱):۔ یبا وا تزامرادے كما فى قوله تعالی فبشرهم بعذاب الیم 
۔ یی کیل وی دش کہا جا تا ہے ' عات طائ یآ یا ہے ' ۱ 

ای مادہ ےم مماورات ہںھہدیة تن هوادى الوحش جرچا رک وم 23 
هالورول ہے آگےمارےہوں۔ 
قا ده :الم راغب اصفهالى ھا کہ برى ہد یک ی تقزم ہونا ہے اک طررح برد 
مقدم وتا ے عاجة سے اور ہہ ہریت مقرم الوداد ہوا ب ولا ارت بلطف بو موادي ال 
بھی تقزم مونا ہے ۔اوردلالت بلط بھی يال ہا ےکآ کے وا جا و یلو کے 
دلا کرت می ںکہشکاری نیل ہےلہذ اآ رام سے لآ اود بر کی ولا ت بلطف 


بول کشا پکادوستہولں- 
جوا( ۳):-فاهدوهم وس اکت راکاد وراج اب ہے ےک فاهدوهم س ی دلاله 
بلط یں ہے یل یبال کف مس 


۱ عسل( ۳):والفعل مده هدي:یپال ےل پت استعال زک کرد ہے ہیں۔ 

طرییقہ استمالی :ا کا باب شرب سے متمدی بددمفعول ہہوتا سے پہلامفعول با وار حرف جار 

سے ادوم رالوا سارف چارہوتا جروا سیا کی ال یکا ہوتا ے کے و الل بهدی من يشاء 
الی صراط مستقیم ورگ بواسطلام اوت ہے ان هذا القران يهدى للعی هی اقوم 
خدشم:_اهدنا الصراط المستقیم روس شعول بلا واسطتر ف جار ے او رآ ب نے 
کہا كل بيش روس رامفعول بواسطترف چا موتا سکب 

عابت تہ نان عذف ااال ل اسف چا 7 جن مرف جا ركو 
0 ور ار سل ملل اھدنا الى الصراط 


یی 3 42 12 18 5351 5 :2 :5 :8 3539 


تفا بر ن قاري 2 


© ها ها ا 8 15 2 3 18 3 10 25 35 3 87 3 335 3 3 133532 99 95 15 :3 15 5 6 5 ج۵ و و 
المستقیم تما یه واختار موسی قومه ال مل واختار موسی من قومه تتاخزف 
والابیصا لک اون جار یکر ے ہو هن چار ولتم کزان 

ادا سل يل ایک ضردری بات می راہ نے ابی کتاب ی س کہ ہدلیۃ کے 
مت تل کےاستعالی کے پارے یل لخد والو کا ا تا ف دبا ہے ایک طق ا یط ر ییا ےک 
بای کے دوس ےم فعو كا استعال پیش اوا رف مار ہوا ےکی مقا م میس دوس امضول 
ہلاو ای مو ورا ”ف چا رکوہ ركرنا ہوگاادردوسرے لبق کال ےک رل کے مفعول 
ای کا استعال دوفو طرں ی ے اوردونوں طر مل اب کن نے چو امہ 
ج کی اتی اکاک رمفعول الى اوا ر ف جار موتو دای کا مھت اراءة الط را کا ہوا او راگ يلا داسطہ 
ہو مت ایال الى مطلو بک ہوا نو ریہ اکم دوس طق کے مب کے مطاٹقی سے ورد 
حرا ر كنز ری کمفعول با استتعال بی اوا سو ر رف چا ہودنا ہے اکن کے ند بک ںام 

کرد کے یی لکن هک رود تال بوك او ریق صاح بکا میک ے 

سيل ( ۴):ہدایةاللہ: یہاں ستاجناي ہد کیان ے۔ 

ای صاحب فر ماتے بسک شرا رگ وتقا ىكل طرف سل برا کے ا واج ا حر 

ووتصی ہیں کن ال بیس ے اجنائس عالیہ کے درجہ شس( کم پچ رہ رای انس عالى کے ھت اور 
بہت سے اجنال ہو نے ہیں )چا اجنای ہیں اور کی ايصال الى اماو ب کے لوط سے 
تیب وار تو ييل ای کٹ حاصل بو تب دوم ری ال موی تمسر اور بجر جک ول 
گی نت کو لبر پہلا در انی کے لے موقو ف علیہ کورچ رل سے ۱ 
متق کی اول:۔ برای کاو تیک ند +کاا ن توو ںکا لکرم جن کے زر راان 
سين مصا کی طرف براي عاص كريط ہے تيت حواس ندا جروا فيا نکن اک ط رح جوا 
باط کیا وط ا کہا فوج ر يقلي كاعطاكرنا- 


53:53:35 15 © 25 2715 2 01 2 25 9 


الفلا وي كركف الرضَاري العا 


ج95 151 15 10 885 85 85 9:15 15 و تن :53 2 115 85 95 15 15 15 جا 55 45 05 1:15 19 180 10 895 :180 185 :3 3 089 019 9 ITE‏ 
مع کی مان :رصا الناں جو توا ہیں تو برای مت ایند تا لی نے اك اد لضب 
2 رق ین ان وا پل ولص روا ہیں دوس کے لفت ک يتل اعفاد يات میس تو 
تن دبا لک لیا موت رليات کے اظ سے صلا رح وف واكم لگایا پا ےگ اورا لظا ے 
فر تک گے ران ولال قح وتوف ویک بزامول دلا مون ينقد ہو لک 
ع شا که زوس مور ی سل تیاه النجدين ووسر ےیک 
مثالواما ثمود فهدینا هم فاستحبوا العمی على الهدی: 

می تیبرت :# تچ ردلائل کے پاوچو ہش اج امور ہو کے ہی كرتن کے اوداك سے 
ل تارمو ےاو رن لمع رف س شل عل یس موف تال ی براي تك صورت سے 
ارال ر ل اورا ا لکت ہی رایت ے و جعلنا هم آئمة يهدون بامرنا ءوقوله 
تعالی ان هذالقران یھدی للتی هی اقوم 

یں رای :# اجناس شال سابقہ کے تمول کے بعد ابر بل ار تال کشا ف سرام 
فر ست ییا شاف ماگ وق سك ر موا سل الم کے ذ ریگ من مات ماوق 
کے زر لك حاصل ہوتا ہے اس اکشاف سرائرکو رای کے تو ل توا اوليك ال نبرک ار 
يهال حص رسج اوج ترا در کے تحرف ہو کے اود یکم راح خاش ہے ان اولياء ساتھ 
دوسرکی مثال والذ بن جاپدوافینا کہ ولگ يحل اجنال لاش سكتصول کے بعد کر کے او 
لبهدينهم سبلنا وان اسشا ف مریگ 

فا کو :کم المت ححضرتہ ولا نا اشر فی تھا نوی نے الآ بي تكامتق ایک مقا ل سای 
کک ط رع دہ چون پچ ہک ی نل ی طا قت ںای کے مال باپ ال رکچ ثكم 
وچ اف اسر ے رم راچان ایا ی ہوتا ةلاد چا سب 


و ود دهد دهد ده هد ده ووووو 


اغا وي فص ركفن ا ضاري OP‏ 
جج 15 15 2 جج جج2 ج0 جج ج3 3ج 3 9 و ا 5ق و ج٭ ےق جج 15 85 39 کا و 35 
تھوڑ اکتا ہا ءال پاپ لبت ہی نذا ری تا بھی فر ہے لك والذين جاهدو 
فینا کی جومیرے بند سه ابت /تصول اجنا لاش کے بعر ابر ہل شرو مول گے لنهدينهم 
سبلنا كرتم ال نکوضرورم زا ل شصور( سی ولال صل ) تک يتناد گے اور ال سکواٹھا اکرمطلوب 
تک مهادي ایا 

سيل (1): والمطلوب: یہاں سے ایک سوال مقر رکا 7واب ے- 

سوال:- اهدنا الصراط المستقی مک كرا الف سرا رات دج _اس ملكا 
لوالا انان يكل اباك نعبد وایاک نستعی نكب چک ےن اخراص مت ملز ات 
البارىكا متق رج اور اختضال عيادة واستعانة لذات البار یکا قو ل كربا سج لو ا كر مراب 
برک‌ما صل ہو ہیں اب اھدنا الصراط المستقیم ایل ما ہے 

ذا هقی صاحب ال سوال کے دوجواب د ےر ے ہیں دداصل ییہاں دو لے ہیں ایک 
لسن والشبات (يالواو) ے اوراي كنض تس اوقت( او کے ات ) سے دوفو ل غول کے 
ايارس جوا بیقر ركلف بط کے مطابق انس سوال کے دوجواب ہیں - 

چوپ (۱):- اکر چ وہ قاری انسان ماب برای عاص لكر چا ےکن ری کوئی ضرور ىال 
کک برای کے ہبی اچنا ال ار لیا لكر چکا ہو بلک یا ے کا اص كيا ہوااورکوئ یج 
اتی ی موتو جواجناس اک با ہیں مالس مول دہ قاری ابدنا جس ان بقراجنا کی 
زی ونی کی وروا س عكر باس جرفتا ياد فى نبل بل شبات دای مہا کی درخواستکرر پا سے ہے 
مکی زار چطلب اجناس اتیک مق تا لین نبا تی مراب الا جنا ی یی ير 
موضور] دسل وچ ےکازی ہے ٹینیس ہوگا۔ 

جاب( ۲):- بر جک رل یل مرا اف ہو ے ہیس( ملا قوى میس ےت #عقلير 


1 5 ا ها سس ا سو سر ہریت 


اغ اوي نی یضار 


801 هو و ۵6 6 :8 و و دون ود و دهد 3053550055۵9225۵ 

على در کی ہوگی یادف در ہک پا تو سیا در کی ار تم یش رال وراک درک اد 

كايا موس اکا طررح تیاور اذا لکتب و رل سے ہدایت با در ہک بااولى یا متوسط درجرگ 

اور رابخ یجن شاف مرا میں مرا بك فرق لا تعد ولاتحصی کے درج “ل ےا 

لے مکاشفہ پچ مره يرما 7 رف رسب رالی الف رسی ری ابچ راس سی رای القدء 

سیر اش 

فرق کلمت :لاریم کول ےکی سپ ہک یرای الکن ہوا ہےاع راخ کمن 

سوق ار اور ما سوا لیر وہنا بی بل رال ارگ زا تی ول اورسی ری الہک ی ہوتاے 

پاک تال ی صفات جل اليم و جمالی تلور ۔اورصفات چگ یہ رای لاب اس رل لگ قير 

ایبول ے 2 

۱ راس قار یکتم جنال عاصل ہوں نین ير چون مراب‎ SEO. 

كلف ہو نے بل قار انان اھدنا الصراط میس صول مرا ب کال ہک درخواسستدگرد با 

ہوتا علب تيل ا ال دول معن جو برای کاتصول ما تب دالا ے یی 7 ےکیونل وہ 
اتب ال اخنااس کے بی تو ہوک ۔ 

فا ره اوراگ نه او الغبات وال ہو فقس ہو ںگی_ 

(۱)اہرنا مش زیادکی بقیہ انا کی طلم بكرب ے بعد ازحصول ہی اچنا ں یا ا ہناش شبات می 

الا چنا الا ربع کی درخواست ے۔ 

(۴) تج اجناس کے تصول کے ہی رکیل مرا بکی درفواست ہے۔ 

بل فا ذا قاله: سسيتصول مرا بک می ل ون بیا نل ہے ہی کین کرتا 

کہ یار تال یں سر اش ےط ران سے ےآ شتا فر ہا سے تا كرتم ان میس ضرق م وکر 


15 335 5 3 5 5 53 15 19 55:95:5: 


اغ ري کرت ایض اوه 


احوال دنياوى کی تلم کو دو رک يل اور تا كم بمارق اروارج يه سے ابدالى يدس بشا سے ایی 
لمحو ضیف میں فول قال ب ں صدا 0+08٤‏ 
ارخاط بكاصية رگ 
ذا تھ ہ: حط رت شا کہدالقادرصا حب اد نا الصراط کا کر ول" چلا لسيرى راہ 
"ل شیاتس کمک اش لپت 

تلف :و وجدک ضا لا فهد یکت ج بینیا پی لح رت امرش لجت رم الثر 
فاکتعا نے نوں اپ ناش د سے ورت ردان پایاٹیس پاپ 
:ل و الامر :يبال ےو ےسا لکاجو اب د ےا ہے پل کر اھدنا الصراطعیذامرے ` 
اورامركا “ل بوتا سب قول القائل لغيره على سبيل الاستعلاء افعل یہا نکیا قاری ايخ 
آ ہار تھای سے بل یکر هاور كردم سج؟ 
الب :انز ا E‏ 57 
ہے بھی ایک ی تسب ہوا یلان ان یس فرق ےط بی لپ یی الاستعاا مہوت 
ارت ادا و برا مجك طلس نلك سےا تساو اگرطل فلت تیل لو دن 
مادعا كت ہیں يبال قاری انان ا آ پ کول ےد ری رب کساج 
لبذ ايردعاموك _ 

بطل لوک يتن ہو رمز لكاي كبن ل یقن جزل طرق دا کے اطقبار سے فق ہیں 
نی فا بت ست ای امیس بن ام بوا می س بھی بذ اموب اع ہوا سے بی کوک 
ملام و یکو کی با تک اھکر ے نواس نام وا اکتا ناد بات پر زج وق کی جا سے ز 
ارام راس تھا وق پر وقوف موتا و خلا مکا تام ھی تھا ا و بات کی کے سد 


2 5 ۵ 3 5 :2 215 5 :ا 5:55 55 55 35 


اضر وي فرافر اوي ع ام 


اہب میس تپ ووسسسچھے " 


سے لام 


ےت الوذ ہے ےت 


الط الاطباق ء وقد یشم الصَّادُ صوّت ! رای لیک نَ اقب ال 
لے 7 بشم سے ون اشرب 


بض وَحَمُرَة 27 وَالْبَاقُونَ الاوز وهو لَه فرش ء 7 
۱ ارتو سے شا (زاء 7ج ۱ 
إفي الاقام وَجَمْعه سُرْط ككتب زا هو الطرّی فی ال کر رالات | 
۱ یچ اوسر اال ار ا هبطر کت بک ر اورسرا نتفر مل_پافنوط رن 2 


یت وت ۾ المستوی وَالْمْرَادُ به طریٔقٰ الْحَق 0007 


رتم کے د ارت اسلا و ادلے۔ ١‏ أ 


۰ ام ای ی ی نے سر Eo kd BUR‏ 


لصف :و السراط ےصراط الذين انعمت علیہ متك بڑےتانئنوان 
ہیں ()ص راک ف تین () تی کی شتی مقن (۳)رزو ںکا اشتراک سرا يران 
میں ےس تج مک ریپ اور دوو نک مصدا یر نصا لی 
نمچ جين بیان ہو ںکی -() ترا از (۳) موی (۳) مع ستمل فيه 
(۴) تقر رات وات وشازہ-(۵) را میک فقو ۷ح یم ع تین _ 


رو اي مہ تیر EER‏ فا وذ 9 88 ۵ را 8 


۔ غلا وي خرش اوي 


B9 2200©‏ 
تھ رح : سيل (1):صراططكا ءا :_صرط الطعاه(با بكم ) 
ست قلغو :طعا وگن لق لکن کے بعد ذا تب ہوتا > 
( )تمل فی ط ربق ورات وی وحمل فيل مناسبت ب ےکہداسننجی تقزر 
جانا ہے( مہ رات دخ اورقا فلل ہو )يا قافلہ راس لل جات ہے( جب قاف لكش رہواور 
راس نگ مو ) اور غاب ہو نے می لآ هنا سريت سک جب فرقم ہوا لو راستقافلہ سے اور 
قافرا ست سے غاب ہوجا۔ ۱ 
نز رات کا نا ال فاظ ےکی ےک ٹن اوقات ساف رکا راست یش نتان ہو چاتا ۱ 
ہے كوي كرا ست نے مسمافرکونقصان بان رای نین والی مناسبت کے فی نظ رط رب یکو 
لقم ی :جات ےک وہ راس دكي سسافرو ںکولف لتا ے ٰ 
(۳)شرج(ات متواترہ وشاذو:۔ بیان راء ت سے لے ابتدائی عبارت میں و جی تر اء ا تکا 
بیان ہے۔ حراط اسل یش تین کے سا ساط تھا بعد ا لكوصاد سے تب کیا گیا ۔ اس کی . 
لس تک وضاحت اور روف کی نات کے پارے میں لور فصیل انشاء تیال بعر 
آ- کیب لصف چنزض میا تکا کي اسب 
(1) بمو سه( ”) ہورہ( ۳)مستتحلي ( ۳ ) مق ابل فع ( ۵ )مطبق (1) مقابلء«منقلير 
اب لف مین ابترا کی تع ومیس موس فض ہو ےکی سے اور طا مآ شرق صت 
دده ستيه ہے ان میں بالكل تای نکی دور سل تھا اٹ لکودو کر نے کے کے سی نكو 
صا کیا کک ولگ صا دشر وف مطبقہ يبل سے ہےاورطا یط روف مطبقہ ٹیل سے ہے اورت زمپرل 
صا دكوميرل مین سك سات کی و ہو کے میں مزاسبت ےلو ال مزا سب تک وج رے 
تبر ب لکردی 2 صادکوآ فزی ترف ےکی مناسبت ہولی مطبقہ بوذ جل اورم ہل مدت 
بھی مزا سببت مول ولاو ل میں ۱ 


83 4149 5 5355 335 2۵ 55 55 3 4 22 


الَظافاري يكرك ليِضاري 


ووووووہ ٭٭٭٭وئ2٭ہومععہ وق ”6۵۵۶ی ٠2522‏ 65 69ےه 
پم اوقارت ص را لوز اءك خوشجود ےکم رذحا جانا ہے تا کرصاولومپرل مد کے 

سا اورمشا بہت ہو جا هکل طط رح می مو فض یل سے ے را وا تقض ٹیس سے 
ہے اڈوس ہو نے میں وتو زا مکی وجہ سے مشا ہہ ولق یا نتم 7 بمعہاسا وق را رام(۱) 
ای نکر نپول ال اب نکر سے اورروٹٰیس نے تقوب ے رولی کیا ا کے اسل عالت 
پش این کے سا تح اطابڑہاے 
(۴)زردنے بالصاد ہا ےکن شام زاء سكسا تق 
)ل قرام ةراط اساد پا سینا شاو م نط رست تن کے کف می بھی اک 
طررج- 
(۵)س را طمفرد ساك شر دآ فی جع ےکنا بک یکت بآ کی ے۔ 
(۹) ما كيرونا یش بی برام ے چوک ان ويل تر جاک ہے اس لے تا می وت کر 
یش برام ہیں ان چا جزاء کے ہونے کے ہہ رمق تق ستویاورسیر اہو ےکا ے۔ 
4 کہ صرال:(ا)یا ُو صراط رتمک صرال عام امور حت اور طم از ان ں اس عل 
معا بلا ت معاشيات اقا ریات شال ہیں ( )یاک صراق مل اعلام ے۔ 
ارہ :قن صا حب سے رت الام دس مصدا کول سے نف فرف 
اشارمكياج- 

وجورضعش: اهدنا الصراط المستقيم ترا تتم مہ رل منہ سے اورا سك صر اط 
۱ الذين انعمت عر ص راط يدل ہے اورصراط بول بے لے ولثمم انها رص دقن بش ام 
وصائن ںو ران نے ای اسلا مي مراد ی جال او و مپرل مث اور برل مل 
مط بقلت يس رک یک ورسم و لت اسلا مہ بیس وال تال ہی کوک مات اسلا مین با 
امت عام مراد ےن کہا نمیا وذ امصراق اول ہی درست ے صداق ال ضیف ې 


3 0 6 5 © © © 53 5 535 5 5 3 


سما بجوم ہی 


المقه ہچ ےت 


تر تا با ی رات 


اه مس حطد عت نت تست سابع نع سس کات مات شاداد داح سس سس هد سس شا سنج مس سیم سیم هط نوات سا سوت سح 


1 بت هه ۱ گے سس ہت 


اا جرح وحن areas‏ جع هه سس هس mam n ma ame me‏ 


شوج طس یا مد دی ان سا 


جح سے تھی تب سپ ھت تاه سوه اند دوس دس کے دای کرک مشش من مد لته ےد سم سد .ید ا ت کے 


اس ند یمیمص وت دش انس داضت ےچس و بھی اق بت جج 


امجح جم ججح جم حو ممه هت تک هت سس اه سا تس ود سوه تسه سک در ره دح رس سج میکح جع دی دہ یی لد سد سس هه و سس ور و و و و و سور ری و و و ی ی ا 


| جو وی ن کا راسترے ہت سیسوس 


الانیاء 7 »یل یل :الي صلی الله عليه وَسَلم و وقیل a‏ 


meman amaene eram 


ا رض کہا ضور بف ادرب کے اعاب مرا د ہیں .اوران سف كها حضرت موی و لاصو | 


| تست مس سسمد ات ساد e‏ 


اُمُوُسلی وَعِیْسی عَلَيْهِمَ الصَّلادةُ وَالسّلام قَبْلَ التخریف وال 


س 


0 


اوفریء صراط من نعمت عَلَيْهِمْ والانغام یال الیْكُمَةء 


۱ اود راء ةراط م من انم عَيَيهِمم ہے۔اوراٹھا م مت ی کا نام ےا رھت دراصل 


ا 
۱ 


| وهی فی ال ضل الال الي يسيد ها ألا نسان قاطلقث ما یله 


ا ام 


۲ 

والسلام سوه اب ماد مل جد دزن یی یسوی مگ فراع سے اورا کے ور نے عمل تھے 
لسع ت TG ESS‏ | 

1 

۱ 


ید سید emma em‏ سا سس اس سس که سس دس داد دج و عم و و ہے یب ها ہے یس ہے یہ 


| یت سے بے اسان لذ ی با . تا ان زد لسن جوا سکیف تک حبق ہیں | 


لی سے ہے سای ی او و وا پوت سم در سے دید مد مدص حر شس 


© © 2 5 8 8 55 5 5 5 5 5 سور ها 8 5 


لس ےر و سا 


٢ن‏ 
راوزل مان زک لئ فتاه ۳1 


گت دای ات 


7 


۰ | اوراول (دیدی )کی دش ہیں ہیں دای اور »مروت یکی کدی ہیں ددعل جب انا نکی ذات س | 


الوح فيه شراق الک وميه من وی كلهم زالهگر اي 


۱ رو کیک ویک راکوت سے اویل کے برجو ابم عسل مول میں ان سے رش نکر جم ور وطق 
زحشمانی كحي ادن وَالقوٰی الَالة فيه ریات الا رضة لَه 
1 | مسال يما جديا اکت اورا تو تو کوپ راک جوا ڈ ھا کے ثل پوست ہیں اورا نکیفیا تکوپ راک رن | 
مِنَ الصكة و کمال الاغضاء والکشبی تَزكيَة النفس عَن الرذَائِلٍ 
| چ ای بد نکو عاش ہیں تست اور اخضاء کا كال _ او رت لھ سکو رزانل سے ابر | 
رتخلیتها بالاخلاق الس َالْمَلکات الْفَاضِلَةِ ‏ وَتَزييْنُ ان 
أ اور اسلو ايك اغلاقی اور عرو صلاصتولن کے ساتھ آراعت گر اور وان اقلق شرم 
بالات سے ا لخلی المستخستة وَحْصُوُل الْجَاهِ وَالْمَال. 
| یت کے سات ای اور وبورت ز لوراك کے ڈر تج م رين کر نا اور بال و مرجي ہکا اسل تیاب 
والشانی آن يعفر له ا فرط من وَيَرَضى عَنْهُ وله في أغلى لین مع 

1 | اوراشروی نت ہے س کالہ پاک اکتا یو ںکومحا کرد او رای سے رای سے ربن 5 


با وہ وس جر و وج سے وو رس سے ہی وروی و مجر ری سے ےہر رع سے ہچ درد سے و نے ےنید وج وه نے ی ا جت نے ی 


9 6 3 5 3 3 5 3 3 5 3 6 5 3 2 


الأظرا تاوق ن کر زاوی 


2 5:95 3 215 2 3 210 :9:89 15195 :19 :ةا 19 5 365 95 3 92 926962 


يع بام بن اج ہد مدآ wa TY ca a‏ اي جحي ب me‏ اع کم و بي لدي era‏ ا مص وی ب لسع لقت a‏ ور مي ل مووي که جم یم تم لوحو حصي لس جو ل مد لج HT SS a tre û‏ می سے سک سس لص حر o‏ اه جم ںی amî‏ 


الملايكة ارين کک EE‏ 


لس لا سے سمش تج مد ہل یر نے 


8 6 ۹ ات 


وه مات وٹ سے 
۱ | ان کے دسا مراد یں کیک اس کے علاده دومری تمتو میں تو كافر وع تن دولوں شرب ہیں - | ۳ 
اي مصنف :۔ یہاں سے خی رخفو بل قاط صاح ب تق یا 1 مھ ما لکو بیان فا 
ر ہے ہیں زمیات ملا عفر ماے- 

(۱)بدل من الاول ے فائدته تک بان رہا ب-(۲)وفاندته التو کید ے وقیل 
تك مان دب وارد ہن نے دا ایلوا لكا واب ے۔( ۳)وقیل ےدوسرےوقیل 
اصحاب موسی تک مراق او لی > بعد الذین انعمت کےمصہداق ما ی راح زک ۱ 
ہے۔( ۳)وقیل اصحاب موسی سے وقر :لیا درل تسرے مصدا یکا ذکر 
ے۔(۵)وقرء سےمن انعمت علیه مد تراءۃشازمکایان ے۔(٦)والانعام‏ سے 
ونعم الله تک انعمت کے اخ اتا نت کے می لفو ی وکن سمل کیان ہے۔(ے ) 
ونعم الله سه اقنرا مم ةكاييان ہے۔(۸۹)والیمراد تیار طور پر ذلوروانهام مصراتی 
( شی اعت می موجود ہے کامیان ے۔ 

2 (۱)بدل من الاول سے راب اكاك ےک صسراط الذيين انعم تکأعلق انل 
( رای تیم ) سے بال الك لمن الك لكا ب 3 کہ ما دلول ہو الول او مت )اور پل 
سب الزات او رکب الصرا ق فن شر موم سے مب رل مضہ کے ات من چو مطل بپ شراط 
م یس ہوگا دتى مطل ب رط ال ين الق تکا سرب الک لچ کر ارا ل میس موتا ہے شا 
جاء فى ز یداو گو کہ پان اخ کک ہ گیا جوعائل ز ی رکا ےو کو اک او ككاعائل ہے اوراس 


193 5 5 9 97 1: 55 5555: 59: 


اضرا ري كركف اي 


248-6 و ] ا وا مهو هجو و وو کک HE!‏ 
کی حکصمت ہے لقصو و اليه تق برل بی موتا ے مب رل مد زو رتقصودبالضیہ ہوتا ے جب عائل 
تعلق غير نقصو وكير تير هونا نو مقصوو بالشب. سات قو اه لکا تلق يتقيئا بطل ران اولى ہونا 
پا ہے ال برقا فونأ عبارت لول + ابرنا صراط الذ بن اتب مک مين كيم کے راستہ بي 
“يل چا وضاحت ريط کے بح رل علوم بواان ع كال اتصال بز اخط ف کاڈ النا 
1 ۸ 

مسل( ۳)توفاندته سح بان ربا برای سوال مقر رکا واب ے۔ 

سوال :جب قصودبالنسہہ تو صراط الز بن اثقت (جوت کیب شی بدل ہے )اورپ رل منہ 
صرایستیم خی رنقصود پاپ بای ے ا فلصور الي كو زک رک کے ابرنا صراط الذ بن 
الم کہا چات سے هبرل من رایز تنم )اور پر ل دوفو كا وک رکا ا طناب بلاکتدے_ 
جواب :ال کیب وكنوان کے فاا ست يل دو فا کر ے عامل ہوتے ہیں جوک خی راس 
عنوان کے م صل مهوت ےا ال لئ پدل وم رل م رولو ںکوڈکرکیادوفا کے یل - 

( یدرک نو حاصل ہوا ےکیوکہ پیل یہ پاک ريك ےک بول الک رما 
کے م ل ہوتا جاو 31 راط ال إن دووف ڈگ ہوا ے اور ں طررح جاء لزید جاء نی نید 
میں کرد زک کر ن ےکی مت یق کی رکا فا کد ہ حاصل ہوا ہے اک طرع يبال گرا رد 
۳ سے کی رک تاره حال ہوا اوراس برل ومبرل مث کے عنوان سے بخ مطل ق قصور 
مون سرامت بر کی دعا )تو حاصل ہو جا ج کان کی رکافائند* اسل نہ ہوتا۔ 

(۲ سي کا ناد صل ہوا ےکوی اکر چ برل ل من الك تقیقت میں مپرل مضہ کے 
لتخي نہیں موجن ما طور کول یل وبيان سک ہوا ےکر شلا بال يدا وك 
شل جب زاو راخ کک مصداق ایک بی جلو اخوک یقن (اطتاب سے نكت کے لے )لصيل 
یں ہوگا زیر رتیل وین یش دشر اب يبا لك رای یم ميرل مضہ ہے اور 


الغ ري كركف ايضار 


سد اد 900566598 04 06 24 :09 240 54 05 6 8 5 5 816 2 710755 
اح رہ يد ل رط ال بن القت ے يج ران مہم يبل مصداق مون یں( قو ل شور سنارت ) 
تو اسل عبات کیب بو یک اہ رتا صراط امن اور ے ہے پل الكل فو کنر تفصیل با لفط 
الاش ہوا او رتیل يلفط الاش رك قاع ہک وج ے بیہا کی کن ہو اک سرا موجن لو مش 
تم تکام يبيل سے تصرف ےتا بل ال طررح اسل موئ لک مطلب یل 
وو راستت جوصفت ا توا شرت سا تح متصف ے اور ہو دعلیہ پا تفا هرت سے و «مو نکن 
راستم سا برا و راست فتطا بل تقصور پالشہ کا وک كروي جا فاص حاصل نہ وت نیز 
تیاده ارگ حال ہوا یوک ج بای لف کی کی جا سے تو ال وقت بص 
ررح مس کے لے اش ہنا ضرری اضر لج مسا دا ۃ مض بھی ض رور اس 
نبت مساو اق کی وج سے رال ہوک جص رایز م ہوگا تارمن وگ اور جص رادا 


من ہوگا وت راد م ہوگا۔ 
فا ما نی صاحب نے صراط الذین انعمت کرک یر باك کے تا اک دع شک 
اکل یاپ رای اواج 


شير :# ج تال وین ے حاصسل مون سج قال چ رای صراط الز ين اق تکو بزل 
الک ما2 طف بیان نت یکیو نکیا تو( خطف بیان )رخا فيه روبياان کے لئے بو 
ےکیونک ععلف جیا ن کت ریف ہے با موف شکور لین وای کی بک 
چو زک رکو رسیم ل و بیان وای ےکی بکواخقیارکرنے ات ےکی کک کی نے 

ج واپ :تی صاحب نے ال تہ ا لمنوان ( برل ومیل متم )ست دوفائد کل کے 
ہیں دوفو ںکوؤکرکرنے کے رال یکاک ا تدان رمع تصش ماصل مو اور 
يفا ده ایر میں کا ای کتوان تعاس ہو تھا عطف بيا نکی صورت می لگوگ 
عطف بیان شال یی ر کے لے ہو تا ےک یجن سکی وج ست كاف تہ اسل ہوا ےکن 


بر 2 ١‏ سی خحت 


اغا وي فک رف الضاري 


تر رن ہل مس لم میس ہہ رہ 2 53 190090007 5 ےھ 


کمک رار عا ئی ال موتا ہک اک رکف« حال ہوا ور پر رتمكلرارعائل شل موتا ہے 
اں‌وڑے : کے ل مول او ینز فصل کے ے موم ے اڈ ال میس 
بھی حاصل ہو ے بخاا ف عطف بیان ےک اس میں وی ی کا فا ره عل موتا تھا اكير 
مع ابص کان تہ عاص لال بوتا تی ای رل والی کی بو دی ے۔ 

مل(۳): ٹل ےمصداق اول ی کے بع رصاق قال کاذکر ے۔ لاص راق ت سوال 
نت رن من ان ہو چک کوت ص رادا الز نالف تک صراط 2 تھا اوآ سك 
اف صاحب نطب موجن دک رک کے اشارہکردیاک می نک صدا ق مزن ہیں اور ی 
مرا وروت مس ہے رال ٹیم ہے خواو دومن ان بوک نکی امت کے 
افراوہوں پھر یق ل تو ی اس لئ ےک ال تلہم میں انعا مكا زک سحاو ججرانعا م دوس ما ہوتا 
س أخروى وديف اور رتا وک یبال سا سباق سے علوم ہوتا ے رٹ نتسه نام 
ارو مراد ہے ری (اخروبی ) طور ى یں ہیں ان متو ںکی بایان سکیم 
المطلق اذا یطلق یراد به الفرد الکامل کے اون وقاعرہ سكت یہاں انعام ے انعا م 
كال جراد ہے اورنھا کال ایمان بی ے برا يمان میں تھا م مو من شرب کک واه ایام مول یا 
نیمشش سے ہوں یق تھا مصداقی اول - 

مصرا ق ٹا نی: انعمت علیهم کا مصداق فت ايا بم السلام لد 

ول (1) :انام ےھت ايان مراد سے یمان سك رول کے حائل فقط ایام مو ے 
ہیں وروی ال او إل لبذ ا ہانش تمہ مک مصدا کی فا انیا ہو گے وروت 
الكل العبادہوتے ہیں۔ 

مل( ۳): وقیل اصحب موسی انعمت علیهم کا صدا ئا لٹ دہ ے لہ ین 


533 18 5:33:33 0617 12:2 12: 5 2 9 


اغلا ري رکف نيضار 


بب لبڈ ا 5 تو وج 
يبل صدا فقن اما ب موق وی اللا م ہیں 
دمل :بيرغو ست وه ی ام اوق نكل سک من کا رامت جلا ے ووه 
“مين يج دكزر جك ہو ےکا کا راسترطل بکیا جار ہا هاورو وذ رذ واد اصما ب موی 
وی وی ٹیر م الصلو 5 والسلام یس( مز یر براك دوس راقرینہ يرق ےک خی رافضو بكم 
ول الا نک یت تسویپ نے یب ودونصاری کے سا تفر مکی ےک مخ|ضو م بود لاور 
ضالن نار نت ج بآ تندہ تمل ل افر ان يبود ونصاری مراد ہوں تو میتی کی من 
الیہودوانصا رک ہونے اس( لين )تتا صاحب نے ان ثالى الذكرووفو ل مص رات نويل 
کے اکر ور وضع ف يلل یا نکیا ےوہ ےہ الق رآن یفسر بعضه بعضا والاتّا ون 
وت 
و و ےہ اولٹک الذین انعم 
الله عليهم من النبين والصیقین والشهداء و الصالحین وحسن اولئک رفیقا 
(۵) اس ب تطعا من مرا خوا امیا ہوں يأك یکی امت میں سے ہوں بز اما 
- موم نک مصیراش بنانا تو کی ے۔ 
مہ( ۵ ): و ر کے تر ء ت شاذ کیان ےک ایک قرءة شل الف ی نکی مہا ےک موصو ل کو 
كرك کے صراط من انعمت كاذك ہے اور بل فر کل ےلوک ال ی نبھی موص ول ے 
او نگیم وصول ہے تیال ین رع یکیل ہے یط مک بھی د اعد دک رک رح 
زاگ لك تمل ہو ہے۔ 
یر ےرا کے مغ كول فک لک کن اکر چاظا هفرد جين معن 
شی ہے اس فاط ینمی رع کارا کی لطر کال ین می د 
قش :دالا نام سے تم شک ات کے باذ اشنا دمت سق لغوى وحن مل 


سیب پپیشس>سیر بی نت 


غرف ري كركف ایغ اوي 5 


ےت لت و پر و و 


کیان ے۔ 
امت ای باب ال ادرالو اب افیا اس لئ اتال ہوا ےک 

وہ ان مفعو لاغز اهتقا (مصدر ) کے سا تح متص کر نے متا تعیب اس فاعل 
نے افعو لکو اخز شتا (انعا م ) کے ترص کر وی ال لے تام صاحب نے 
اما ی یال امد کدی ے جرانعا ماھت ( بكس رالنون )سح موز سے اورنلقت موز 
لت( وان )سے اور تکاپاب ےکرم ومد وم نا زک زرم »ون ال سے باخوز 
ب فلا لک زگ ام ہے میتی خوش مال سے اور زمدگی اي اطي گمز ری سے پچ را لقت 
زاہج سے )ھور بكس رالنون )كو ما وكيا چرم مرو وتان شور ےک افع لامر 5 والفعلهه 
لاہ ھت کی بروزن فعلد لبذ !ا کی م وگ وه عالت وکیفی تک كواضسان لیے اور 
انتما سك بر چوک اس حاات کے لئ اسیا ب مشلا مال ددوا تکا هونا ضروری ہہوتا ے ب ربطور 
از ملع تکااطلاقی ال ا مہاب يا ارت اعا کا سپ بک 
مجازانقت اس -ك لت ہی كرما م طور ی صاحب اسباب نم ہن اس میں ای یکی 
رعامت ‏ ھدے۔ ۱ 

امن النعمة: اکن ہے ایعمال امت کسام ای ماخوذ من النعمة . 
مسلر(ع):ون‌هم اللہ سےا سام ممکابیان ے۔ یی ےلم بار تیال عا لانعد 
ولاتحصی ں كما فی قوله تعالی وان تعدّوا نعمة الله لا تحصوها الاية نانم 
شل سے اجناال ای کے دج رتش د میں ہیں (۱)دناوی(۳)افوی برد نياو ین دم 
پ ہیں )وئ یک جس می كسب اف کا پل ٹل نہ بو بادك تال یکی طرف سح ہو 
۔( ۴ہک یک تی میس برق ودب كسب انسالی اخ لبھی ہو ۔ پھر دی وتم ہیں (۱) 
ON‏ ۱ 


وج جو بع چ رق و وو بت 2ع 


08 
1 5 5 3 12 © ههه مهمو موه ف م وی 58 


وی ردان کی مال یسے رورع» عم مرو نکی مغ رک دی پھر 
ا کو ا ی ا 
ملک ی ےک اصل اوداك دو كرتا ہے قل فا رو كاكام دیق ہے جن س طرں ظا ہیی 
اصاروادرا کآ کو سے ہوتا ستيان مدنا سور كل ريق کے اھ ہے(د نک )يا شين وغیر ہک 
ر يست( را تک )ا ورای ط رع دوس ےت کی باط رکا ع اک ربمم رل و تص ر تک 
ایی اسرعت سے انا لین لمیا دی ال أمطلو باو م کچ ہیں پھر جن ول سے جه جاه 
پر رک راتس يرا سين الى ای كوا مان ےنات ہا رکر نت ےک 
کہا جا تا ہے ۔ وق جسمال ىك ال جب بد نکو بيد كي بک ہت سح اد رتو کی ری جرک 
یم میں طول کے »وت میں پچ رات عا رفك کیب وت تیب کرت را عضا کا کال رکھنا 
رر نکش نزو كاين ناريك موی جسم الى یس رال ے تيرد يرد يلو تال موتك اش 

یی شال بي انان اہر ہر کے نکی کر رل سه‌اورانبان اخ 
ولا <ثہ سے می نکر ےار چا نکیل سنارت یع اہو نا ہکان 
كسب اناف ليك + س هكم انان ابد ویر کرت ہے اك ط رح اپنے پد نکی تین 
کرک بان ین سے ب انز ل#فتول کے اد اکر نے ست رات ابی يم سم 
ہس مشا بل کے پالو نک نو چنا وی ہکا فی البدلية -اوراخرو کی مثا لكر پاری تھا ی ۶ا 
7 خرت میں انمان ےت مكنا ہوں مک وچ رک رجش ديل اور رای ہو چا یں اور یلین 5 
ابرالا ا دک کے لئے مجنا یت فاد ل‌اللهم اجعلنا منهم 
مممملہ(۸):۔والمراد ے عبارل طور پر بركاره انم کے مصداقی یں القت بل جوموجود 
> )کیان ے۔ 

نی صاحب نرمارے ہی کس ات مس یش نونمم سے مراداس مم 


55555 5535 32555 یسلت 


كاري لزغ 


ہت وس مہ یل ۴ ہہ 
ارو میں یاوه اویش جو وصول الى لا خر بتصول الا 3 کار ای ہیں نے حاصل نر ج مرگ 
"ی العا لین ان لول کے راستہ يرجلا كرتن يرآ پ سفنتم ارو يك انها مکی او وناوی 
یں جوتصول الا كاذ د رب لک وہ نزیٹس ونير كر ے ہون اب جب یہال ا ستول 
کے موا فی تما دنراد از رے ہہدے ہوں یا نے وا ال ہاش ت صیشہماض یکا 
استعا كز رسف والوں کے لئ لو بطو رت یقت کے ہوگااورآ اسف رقو تی کے 
لور پہ ہے انتم (اخرویہ یا دنياوق جوز وصول الى ار )کے علاوه اور اس كر 


انعا مك سراق کش کی علاوہ بی و مین وکا ف رسب شال وش رک ہیں 2 برق 
طور نی وی یں کنا راوز اد وی مول بل - 


0 لس رت لضا e‏ 


مود رود و ےسج کا تیمس جس یمیھد سد وی ا[ هد جه سن رٹ r‏ روس ری ar a a e‏ ا یر بعد زی سی حسم یی مجح حیسم ae a ae‏ 


وج تساج می ید ا امعو سس ی ریخات دم مو ی ری es‏ تح یمر ہس جک 


می سد لع a‏ عجرم ےہ یع لمح a‏ وی a me e o‏ لا ہآ ا لج سح تع ا ا س ت ی سم دع جع نہ ہے ہے ےجو ی ہے 


نت که ساب میس یی سماتوے و مج ترسم و ہے ایت تست مسوم مو شی لے کے ات رک لم یی 


بو سا ند میسن ی 2 


2 اور خضب خراوتری و طلالت سے سای کی لقت کے پائ ہیں اور اس عہارت كوأ 


مروز رخ 


0-0 


یہ سس موحت سس کے جم مي ساسح رر سے دح ری ممص مان وعم سا صم ی ات دب سس ی سا تھی سے وه ود وی عا ماه بس یراع يكبم مان و و سے سے سے ےا 


سے مھ ےکھت سوم 1 سو ہت وا وی سب که وه ی مج EE‏ اس ہت شی سو سس کس سم 


۱ سک رد سرت رت ۱ 
7 و و 6 ۷ قد دا جا چے شر سے قل می | 


| 6“ ود ود و وه موو 


غا وي كركف ضاي 


5 وَلْقَدُ مر علي ا وجي 


ات اسب کت 5 تحت کے جس ہے ۱ 


.0+02 وت اد تس قر 
نزي کب تال ےاگرالا یں مرادى جا میں جنم خی اوی دوفو ںکوشال ہوں۔ | 
اخمرائ ملف :سارت بالا والخض ب کک تین من كاذ كر ہے نی فص درل 
ےر( )بدل من الدین سے وذالك انما یصح گر پاکابیان سےاوراس ریا يس سام 
سجن اقوا كاذل ے۔(۲) وذالک انما يصح سے وعن ابن كثيري ل ایی وال 
مقر کے دوجواب ہیں۔(۳) وعن ابن کثیر ‏ والغض بك ل اپ ترمو وات وکوزکر ‏ . 
کر کےا کیو جیجبا تما شکاذکرے۔ 

مل( ۴:۔ بد لن الین سے را باشل اقوال لا شک کر ۔ ۱ 
)يبقل یس کہ غير المغضوب برل کل مان الكل © الذین انعمت (مپرل۸د) 


HHHH 


رق ری وت رف ارت 5 


60684 ۵9ہو ,و.ره_._.۔ EP‏ او وو 
مر تہ 
کیا وجہ سے اس ال اتا ركسب الزات وصب اص ران »گس 2 
۱ م ابي ہیں کہ دو فضب بارى اورطلات سے سلا بیس ہیں ال کیب کے بعد ایک 
نگ پات سج هكمو دفر مات ہی کر تام سے مت راصو یکم ان مالسلا 
کی طر فبھی اشارہ موكيا کول ايل اقول کے مطاب ق “تمي نک مص داق انیا میم السلام اور 
اس کا بد لآ کے خی امثضوب ول لضان جکروه انیا وت توب ہیں اور نی ضال ول ہز اوہ 
رم ہوۓے یرل کل ے/ گرا رما ل ل و ردو کل ارت یں ی اهدنا 


صراط غير المغضوب علیهم ولاالضالين 
(۴) دوس اقول :غير لفطو ب صفت ے يرال می وو اال ہیں يا مورب تمعن ومقیرہ۔ 
اس سے ييل ابل فائده- 


فا کہ صنت یش اس موصوف بردلا کرت سے اب اگ رصت ایس برولاات 
كلس جو قبل اصفر ت کی موصوف بلقن ہاور پایا اج ول نت ال غ تکوصفت موفی ءا 
شف كت ہیں مشلا موجه زی ایک زارت شان ہےالموجودن بھی اتف من ير وال تك 
ہے جوکہ پل ز يدث ل موجووقي تق رموالى مثا ل الجسم الطویل العريض العميق اور 
ارو وشت تایلاع زانه پرولاالت 02.210٣‏ يبل مرصون جل مو جود دموا قآوعشت 
مقیرموتصص كت ہیں مشلا رل الم رل وش فا سے رانا کوشا ی تھا کی حا لم نے ا کو 
این اہ عط اک کے بقیرانساٹوں سخ کروی الكت کے یی لک کہا تسرهف تکا 
لف بيش مت رفاك ہو ےن موصوف مع رف ہوتا ہے او رشت متیر وقصص ےکا موصوف بیش 
کرو وتا ےا ب دوسراقول ی ار خضو ب ٣شت‏ ہو ركاشفر کت 

(۳) تی راقول :کش #صصم ہے کوک المت میں اعام سے مراد اتی م افر وک تھا #رانعام 


زا وي كركف الب ضارن 2 
۵ ۵ ۵ ۵۵ 6-9 0 563566 6 ۵۵۵ ۵ 0 95 53 25 45 45 405 195 5 5 9 :9 لصو 
ارو ایمان ماوقا بجر كر یمان سے اما نکا ن مقرون پا لا عمال سراد جولو مدن کے 
مؤي ناميل مراومو گے ال وق صف اور وموضی هوك اکرو مو کمن خی مخضوب وره 
ضال بین او را ايان سے ایا ن ق مرا ہوخواومقمرون بالاهال ہو ياش وت ال وقت ٹیم 
فو ب عف ت تم ومقید دب ےگ یکہراست می ن چ لیا ملق موش و موس جرک 
خض بی وضلالت سے سل میں ہوں صف کی دوفو ل صورتڑں میس ( خوامكاشفه ہو ب میرم 
ہو ) قصوو لكلا ميل وگول کے راستہ يرجلا جک جاع مو ں متو ں کے لا ےلت ماقم 
يمان کی جامح مول اوقت مقیرہ ےکی بامع ہوں (لژنق غير خضو وفرضا لک 
ہوں )اور ہے پا مق ع موصول (الز ین انثنت )کے ترون بلصفة ہو نے سے پا موصول 
کےمقردن پالصفت والصلم وس كل وج سے( بیز ) گنان کیب برل اکل سے وضا حت کی 
عسل مو یک وہ من ای خضو ب ونی ر ضا ل کی ہیں أب في رامخذوب نے ا کی وضاحت 
کرد مو ومون مين 7 خضو ب ونی رضال مول گے 

فاده :الت گیب انا سے معلوم ہو اہ یہ جو جمرعامطور بركيا جانا سے( کہ راستہ ان 
لوكو نكا جو مخضوب ہیں اورش چلا ان لوگوں اي جک ضال ہیں کیج مکی شور 
تن یی و رت جمہ يول کت ميان سرامت چا اور ین بے ہی ںکران 
راض ب یں +و اور را دگل ہو ۓ (اكر چم صل الور اول الک جر ے) ۱ 
م2 ) :وز ا کل انار سےسوال مقر رک جواب ے۔ 
سوال :# خی فقو بکوخواہ آپ بدل بل يا شت چزی کی بكري دولوں لاط * 
ترکی ني كول راد موفل نال ہام نگ وجہ سے گر چرمضاف ال لع کی 

ہیں عب یکرم رجت ہیں معرف كل ی اس چ بھی اکر چ ىہ ر ضاف الى المعرف 


تفر بت لزضارن 


سر دوه و وود و و لیر ید و و و و و ود و 5 تل 3و 
مدمرق وق هو بح یں و چت ییک ای بد لكر مك1 صف ص 209 
كما فى قوله تعالی لنسفعا بالناصيه ناصية كاذبة ا کی گےمفت مو جودے کاذبه 
خاطئة ب هاگ پد ل يق ا طررح صقت یں نک کر مرس موصو یش مد 
آٹھ چڑوں می شرط موی سے ان ش کی شرا ےک موصوی 00 اکر 
اتف ہوں مالک امل تچ موصو ق مع ض ے او رش کر و ے اس اعترا کا جوا ب ایک 
کی ہکان ا کمن دوہی كرت تاد لک یگ دہ تا وبل یا جز اول میں ی تن مبدرل منہ با 
موسو ف یس اور یا جر بان (ہرل با غت ) میس موی تو اب جوا ب کن اول بے مول 2 
اول می مبرل مر (پرل 00 سک کے مس ا 
اول کرت ہیں۔ 

أل ازج وبل ایک سيل سف بود بات ہ ےک طر الف لا زا روسل وار 
تم پر ہوتا سج ( اوداك وجب نص ملا معان سا لياط سے لول ک الف لام اذ اپ رثول 
کے تع تلن ورد نکی طرف انار كر ےک اور وروی يبل ہاور وكا سرا نیت علا 
اس الف لا رخا کے ہیں یا الف لاما سے روک میس تک طرف اشا كر ےگا اس 
کا نام الف لامب ہے را سک تن مق كرو يعست تن حیٹ بی ایلع نین 
الافراد کے در میس سو الف لام ی اورا را سی لص تک طرف انار ومو چک قن نس 
٠‏ تق ارات الف لام ترا اورک ری تق یمن الاف رادي رشن ہق ا کا 
٠‏ نام الف لام پر یکا ہے ای طررح اضافت داص ولات کی چا رم کے ہو تے ہی کرو ” 
` موصول مقترن الصلہ م كربا فو اشار کر ےگا بدخول کے فر رن كور( با دا لومي کار کی 
رف٠‏ و موصو ل »ی ار اوري شار ہک بی طبع تن حيث نی یک طرف تو موصو لک با 
اشا ہک یا بيعت تت نافرع ہک طرف ت موصو ل هر 


953 53 5 595555555: 


غر وي فک دف الغاري 


یہر بد سر رد 15 ج87 12 لہ 115 15 پر 1 15 رپپ 15 9 2 رر رر رر 1۳ 2 سر م 
جواب:۔۔اب جا بك لق اول ہے ےک ہم جز اول س حاو يإ كرس ہی كل الذ بن یش 
ال بین وصول عبر پان یکا مراد ے اورموصول عبد مق جن طررج کن وج سرف »وت سب بج 
ات ان ہلص م وتيك اک طررة صن ودک مکی ہوناسے را« الى الطب ام نم يلض 
الا فرادالغیر معي کے ہو نے و اس متقام ل ورگ رکا یا اکر گے تو يدل ومپرل متكي ربل ۔ 
مساوق موك او راو فرش تر باق دای ہے با کرای مقا م یس موصول عبر نک مراد ے 
ا لکی دی بي سيك یہاں موصول عبد مارگ یکا کیش بر تا گرگ الذ ی نكا اشاروافراد 
موي لمر ف بال اورت یی افرادكا عد سی وچ سے زر سے اورشہ ای ۱ ل رحیت زات 
مون مراد سجن كمالف لامک نیا ہا سامت میس انعام افرادازانی بہ سے طبیعت 
اال نام او رط تق فصن تھچ فارگ ماج ترا نیا جا سك 
که يهال سےا فا م نیشن راد مک ہکذار رو جب شتو ن نا پال وی راع 
مین »و یکہ موصول سس هر مراد كوه جندافرادا الى جک مصوف بانع م الام وی 
ہوں رن چنداف رادم تیم ےک خواوہ+انمیاہوں کی کی امت لست نول 
کالمحلی تقد لک کے جرک اف لام سے مب ہو۔ 

7 بطو را ہا د کے ايك شا رک راو رای اور« ليا شعي سه 
“ابش یشک یکین انان ےک رات مول فذدہ کال تا ے جل میس اس چ ےکم رتا 
و لاو رب مو كرد وم ا'راد كر ب“ 
اور پات کےاشبات کے لے پیش سے ہیں 1 کوش تسب 
او ( :تج یی مردرکوددای مدای جنا كذ سسکا مایا لوب 
أده( )ا تع کے تما ارک یکا سام م ام میں کر فر 


نر ہو مس تب 2 ہی 


قفاري بنیز این 


ام ار - هو 
يناس ا نكرل ال چک ےگ متا ریت ہو لیکن لامش زادہ ےلگا ےکم عاطق ے اور 
ال کے1 خر بی جا ءكو لات کر دیا چا ہے جس وت عطف اب یی امل ہواوراس میں تر قی 
کو از باق ای ےکی زرا ر ہتا مول اورت کر ےکنا ےک یہ 
يال رل ضور كرما مول اک کی اورگوگا تاداس مبراارادہ یک کر 

اب ا شر ليم مر الفلا )من یکا بكرو سچاور اک وج سے 
ا سکی صفت؟آ گے جم فعلی (ج وگ کر: میں ہے بن ہا ہے يهال الف لام ہہ کن ہنی 
دسل ےس کہ یہاں فر د تن مراد و نرک رال تا لسكب مار گی کا موعلا واب ی تتصورش ر ےکی 
خلاف ہ گیگ الک ديس کم رک کشم ساب سے می رای عامل وتا سے اور نی 
بن سکیا ہے لمرو ریت پل ہوتا اراس یفوتم پل رن ہی 
ار کا تناو هروش چ اک وج سمغت بم لفحل گر مال مورک ہے 
دش ہم هلس یوت ہم ہیا سے یی تک استدلا کیا ہا کے بک کم یکو ھال 
ناتے يريم ساو اتدل ل ت ہوا؟ 
جواب:.۔ مال ينانا مفصودشاعر کے فلاف یوک مال بیش قيد ہوتا ے ال شل دوام 
واترارکڈں متاخلا ف صفضت ےک ال یس دوام ات را رو ظا ہوتا ے چاچ جاء ل زیدرالب 
اورچاء نیازید راکب مش فرق بیہ ہ ےکمراول ما لک لس كدر پا زیا پا کروه یش اه 
ہو نوالا ے اورثاٹی نا لكامتق ہو کی ماس بکرم سے پاک یرآ لک دە ونت بيت من 
تھا یش سوارال ہوتا_ 

مھ ی 

ذى الال داجب مول ےاورحکمت ب لكت ہی سک تا کہ تال بالصففة واموصوف نآ جاو 
دبال تا »وت سكل رركي اواك التبا لصف کی جا وا كا جواب مکی دیا جانا ے 


مج و و وه وج و دو روصت و وع 


غا وی ركفي رارضا 


ل ل 1 2 
کر می فر ہہوگا حال میں تقد ہوتا ہے دوام واست راس ہو اورصفت دوام ترا رونت 
كل یبا لگ ورت حالیت می لمع بی اک وت مدرم کک ےک لیاں ديا ے اور 
برداش تك ےک ہوں ار اس می کالم كا كلم فر کے وقنت ثابت ہوتا ےک دہ 
یم يك رو گال ىكلو اتا ےلان می لز ر ے وقت ول تنسو رک لیا ہو ںکمیراارادہ 
یی کرت 
دمراحادده 0 إِنَىْ لام عَلَی الرَجُلِ ملک فكمي 

(بلاشہ رش تر جی ےکی مردکے يالل ےک رتا ہو ںو ویر ااام ر ہے ) 

بای ملک تذل ف الا بہا مکی مج با جوداضافة الى الع رف کے گر ہے اور 

فت سج الرض ل مخ رفك وجردی ےک الرل مقت ن الام العهد التق ہوک مھ ویش ہے بات 
نت یں بن اتف را اس ےک مورت یع الافرامكان تیاو رات نكا كرت 
تن اورم ر وریت یل متا کہ نای وک کی ی اتترا بن بذ اہ رش ہوا۔ 
سوال :۔ اصورتطل بک ہک ای صاحب نے وو انها دکیوں ٹیش کے ایک یکا زک رکم 
کال تایا ارو لکرد يناا حور مكلام ر بکو۔ دوفو لكوك فك کیا ے؟ 
چ واپ :کلمت ب ہک شع ر ملا اس لا ل کے طور رس گیل اشع رشعرر مق بل استدلال 
ہے إل كما فى قوله كفانى ولم اطلب قليل من المال کرو یع کروی ہوتا 
ہے ددن ال يعت پاک س ےکوی هنا سپ تک کیو کے یہاں مشت جت فعلیے ہے ارآ ت 
پاک سے مناحب تکھا ا ہے وه ممادرہ ای ہ کرو بال کاو رہ شل و مر ف شت ان ہا ہے کے 
شل جاور بعال ےنی رکا م عل ناب م ہونے یں اس لے دواشہا دعل کے 
جوا پک شی انی :سقالون سكي راو سل جس طرح ول نی الابها مکی وہر ےگرہ 
دس میں اسی ط رع بل ال ہام سکع بن جاتے میں :مس وف كران 


وہ286 چ2وج٭222255ہ٭8جھ 


و 4 و 


ار او پت ا ا شارت 


E‏ کےدرمیان س مويق ا رت 
یار لمع رف مومع یکی عفت بن 2 ہیں چنا توشر میا نی میں مشا كز ريل جار 
وت ورب وک ہت ایک نیتال شراک ی تما ل ال وقت جاء نی رجل 
غیسرک وجساء نی رج ل مطلک می نی رش حرف موس ہی او رشن ہو تے میں الہ 
ان یر کر و موخ ہے ای ط رح کت وگو ضبن ہیں اب اگ رکو ری یک 
ل لفقل تى ارک راکاد ن یہاں خيرم رفم ولرصفت جاخ رفوتل اس کے ضرا ف اليم 
.سو نکی ایک تشد اتا لک ای جد ہے ک جلت دلت ول کک يليل في رکون 
تی زم پل ناس ناب الى ط رح الا نہ کے ہا بھی تا مكائنات ثبل روت ضر بن 
ہیں کین ( تین ) مخض وين (غیمملتمین وما یں تذ اب هرك اضافت خضو بك طرف 
کال ایک ضد ن سب من رمع رز اور پیل موصول‌معر ی فت بك 
کیاصلاخیتءر كي ۱ 
اقتراش: اک یآ پ نے ممصو لوعي ر5 کہا وب ری 
كمالك تف بھی مور ڑرے۔ 
اب :۔ اکر چ عبر انان وہگ رہ ہوتا ہے اک رح من میرف ت ہوا ہے اوراس به 
ممرفہ سكا حكام جار ہو بے سے یں یکذ الال کی بن جانا ہے يبلق یں ہم نے وج 
لا سک مخت گر تاب مت ری کال کر کے مخت مدا ےا 
لمكا ل مر یل 
مل( ۳) نا نکی سے واخضب ک دقرم وار و 01+ 
اکا زک ے۔ 

ظ کر فصوب بذ ھا اورا کے توب پٹ ےکی ایک زج سک 


21 :1 وج وجووو موووو 19 :1 15 وع 


رفاو فصرك في رارق 


و دوه و وہ وع وھ هو 3583362555525256 6 139:10 :3 


ہت سوال :۔اوراب ال یرعش مو اک شہورٹانون ےک مال وذو الا لكا عا مت موتا ے 


مالک يتبال تم مر والح کا عا یکی ہے اورخی ا خضو ب ما كاعامل الت ےا عا مد 
کہ ہو سے جو تا نو شہور کے فلا ف ے۔ 

اب :۔ عائل مرکا اھت بی ہے اود یار چ بكلا رف جار کے رور يان 
مار توب ہوک رمفعول انق کا او رر ف چاو کش واسطر وؤ ر له ےنحد ی کا اوره بے 
توف جاده کے بارے می ضا کرو وک وا سیل ہو کے ہیں تح یا ال ای وال 
بل ہوتا ہے چا نز مب الل ورام ب شرب نکاس ہے اک اذ ہب الت رلو رام جورم 
فو رلفظا رور ےکک کر منص وب ہوک رمفعول ہے اؤہ ب کا او جب نراقت 
موااو ريرك ى انمت لو اتی دعائل پا کیال ہد قاو ہو کے غلا ف هوا 

آوچ ل: غ مفعول ےت ل موز وف اموي کنا ںا جب افحقیارکر نے کے وقت. 
القت یں انا مک صدا ایا نكال مرون بالا یال ہوگا جک رشفسراندت اور (اعنی غير 
المغضو ب ) كا مصداق ایک نی ر ہے اک کر اون کف وض رکا «صرا ایک ہوا ے۔ 
و جيب حالف :نی اتنام کے لئ از سل جب نعل ہوا ركلام موجب موتو ھی 
موب ہو ہے اب ہ مکی خی ملق ناس موی نکی طرف را تھی اور تن من بجر 
ارت بکپائر کے تخوب وضال ہو کے ہیں نے غب ر نے كر اتا کر و اکر بض مطلق مرن 
اوجودانعام ابا کے خضو ب بھی اور ضا لبھی (بوج عصيان کے ) ہو تے ہیں يل ان کے 
راس کی ضرور ال راع مو نین کے راسد پر چلاۓ برک م کے سا جس ات خی خطوب 
وی رضا لك ہوں کان ہہ اشارا وفنت چم وگ چ کات رانا تم ہوک خواہ 


سا یتس سس نی نو 7:12 43 193 


الظافاري کن رات 2 ۱ 
ووم اغر وی ہوں یا دنیاوی مول ل" تی ےت سو 7 2 تو ری 
صاد ]2 هکل از درف اتا رخول نی 1 اش میں سق ہو۔ 

۱ سوال :۔اس میں دش ےکر اتا کلف( يم انعام رالا ار ےکی تل وال ئن جیکررے 
ہ سن یک ایک م بھی تی يبال لوطت ہکا نعام می ںیہی شک ری پڑے۔ 
جواب :حرف اشا الأ يلل يبال نی ر ے ا کی ال ويح فو اپات مامت کے لے 
تھی باق نام کے لیے استتعا لکیا جار ا ے اور شمبور ےک اسشا میس اسل ا 
مور ےمعلومبہوتا سكم می مقط عو كلام ىلجر ہوٹی ساسكا 1 نے فی می یں بوتاو 
ج بی میں ال تلا ماسب بسک يركو جب اپ ان موضورع ل( اشرات 
مفائ3) سے نكا لکن میا زی میس استعا کیا جار ےت مم میا زی اسل تل میں استما لکیا 
اس گرا کو ی ت نایا جا قوفتم سک کا کاب لامآ - ایک ات مغائرة 
سا لک راشا میں استعا كنا دوس ا ا سم بھی فیفخ می استعا ل کرای 
تس برس کول ہی بای جا سا ی کی صورت عكر الل تو ہہ( تم ی 
الالعام) پات تنل 
َاْمَضَبُ: قَورَانُ اس عند إرا5ة یفام » ذا سيد یلعای 
| اورفض ب ون ول ج مارن ےکا ا ہے انام کے وقت ء نر جب ا بدت الثرتا طرف کی جاۓے 


ا تہ کرت وع ی تخ لایب 


ا غر قاري داري 


E 
8 1 ووصووووو و 8ق جه‎ 


جا می لہ یی بجی ات( وہ جج اق E PRD BEH‏ 
ہے اي ے سم ال ارم ها و رت © تور و می 
۱ ء فکانه قال لا المغضوب علیهم ولا الضالین ء ولذلک از 
| گیا تھا نے ہیں قرا لا الْمَعْصْوْب عَلَيْهم ولا الضالین »یتنا زیدا غیر ضارب | 
آنا ريا غَيْرٌ ضارب ‏ كما جاز آنا ردا لا ضَارِبّ » وَإِن امتنع آنا یا | 
اما جیے اتسا ریا لا ضسارب ہا ےا رچآ ازب دا بضل ضسارب ے۔ | 
LS 02‏ 7 و ی E‏ 5 شاع و 2 ووو 
امشل ضارب » وَقُرِىء ( وغير الضالین) والضلال :العدول عَنِ 
| ےر کن 9 و 5 1 
ا اورالمثر ایس سیر ل سف ا يسن ے۔اورضلا ل راوراست ے رجانا > أ 


و سی بر و و کو و و وہ و و کو ا و سا مرو 
الطریق السوی غمدا او خطا ء وله غرض غریض والتفاوث مَا بَيْنَ ' 
ا چان اد ےکر ملعي سے اود طلال كيك ای کرادم میدان سے ایس کے ا لی دنچ واو ديج سل درمیان 


آذ رافص كير قل المرب عنم له بای هن 
بذ فرق سجن کیا رمخضو ب گم سے دراب اتال نے انه کے پارے مر 
من الله وَضِبَ علي و الان اَنضاری له تعالی فذ لا 
منم لل ووب وی اد نین ےنسا گی میک شتا نانک سال | 
من قبل راضلوا كديرا وڈ وی مرفزعا وَج آن یال الْمعُصُوْبُ 
| کرو سے وضع لزيا فرلا هی نش تی کی تی ناسکی ل) یبا | 
عَلَيْهِمُ الصا این الْجَاهلوْن بالله :لئ لمع عليه من وق 
شوم سنا الا دبا ری سرت سے ہا با ملد ان 
لِلْجَمْع بَيْنَ مَرفة الْحَق لذایه وَالْحَیْر لِلَمَل به وَكَانَ الْمقابل له 
| ی لاد اور رگ ال کر كيه دوفو ں کی مترفت عطاك لق ہو تق اب تم عیرکامقانل وه ہموگا 


ولس صىىمیسس بییبنىیسیي 


HEEE 


EA ۱‏ مس هجو 

من ال ای 3 الْعَاقلَة وَالْعَاملَة المحل بالْعمل قاسق 
ی او ںی همطل موی موجن نجس تقو سك للم دمن | 
موب علیہ بو نَعالی فی الیل عَذاوَعَيب الله يه 
قوب اکتا نے دا لکرنے وا یھ يرش وغ ب ال له فراع | 


و ف و ےت مک ا کا ا ا ا ا ES‏ لق و 
وَالْمُخل بِالْغقُل جاهل ضال لِقَوْلِهِ فَمَاذًا بَعْدَ الْحَقَ إلا الصَّلالُ وفری 
| اوقت عا لکرنے والا ال وگراه کب اللہ تھا لی ےق مادا عد الق الصا را ے | 


ولا الصَأَلِيْنَ بالْهَمُرَة على لُعَوَمَنْ جَدٌ فى هرب من اِْقَاءِ الساکنین 
الا الان سای ترا ہمز فق ح کے رات یھی جا أو لکشت اسان بہت بها سكت ل 
ينف :ارت بالا لآ شر یآ یت ہے تخا مر ید پا مسا کیان ہے ۔ جن 
یل در زی سب 

( )والغضب سے وعلیهم تک اراشتنا ت کے ن لغوی و مراد یکابیان ے۔ 
SO‏ دک كيب مدوم ے۔ 

)مر رةس والشلا لک لفلا کت حو ہاو ول جاب کے۔ 

)رو فر اشا شا می قرا رت شاذ+کاؤکر ے۔ ۱ 

(۸)واصال سے و لكك ضلا ل اشوک ن ے۔ 

(۹) ول خضو بم سے تر موا لضا نک خضوب وان کے مصماد کیان سب - 
(۰ا) وق رک ولا الفضایشن ے؟ مین کک دوسرکی ایک قر ,8 شاذ وکا کر ے۔ 
کت عبات بعدا سک قصی ل ذک ری ہا - 

مل( ۴):۔ والغضب سے وعاليهم فى محل الرفع کک ماد اشنقاقی سل لغوى و 


کاب سل 


رارق بت رار ا , 


BEHR 
مادق كابيان ےے۔‎ 

خض ب كام لغوى سے و ران تفس کت راراوۃ الاقام خو نكا جو مارنا بوتت ارادة 
اتقام کے( یہاںنو سم خون سج فقہ یل عبارت سا يس نس اتلد یہا كوس سے 
راون یرفس بو نع تقو جم فول واقس اک خو بھی وتا ذات 
رو کی وت ےس تعدا فلكتت انس دم يآ ے ہیں نص )او رانا کا 
می ہوتا ایا ايلام الى فرب مرا لوک وتو ہو رازا ہے اورا کا ایک 
مشبو رواب ےک اع راشفا ایک مبادیی واسياب ہد تے ہیں اورایک نمایات ومسبیات 
ان جب تی ضا ارت کت کت ات کے 
یں جنا نچہ يبال »كو فضب سے اتتا م ینا راد ےکی خو ن کا جل مار سیب برا سے انام لک کا 
ترطف :ارارق تھالی نے ا بندو لقن فرمائی ہے اور اد ب سکھلایا ےک کرای مکا 
ہو عیغ خطا بکااستحا لکیاکرواور جب وک رض ب ای مول یف خطا بکا اتال کرو يا 
مان کے فلب میس يکقیده »ون چا ب ےک رت پا ری تیا یکا تن ضا تو انعا ما بی مون ے 
اورقض بش اتا قكبرك وج سے ہوا ہے ورت يار تھا ی فض بل فر اس باتعا م کے 
تھا ہیں۔ 
مسل(۵) ام ےم نانچ ارزگ ناب عفر 
سوال :اس متا م شواک ال دنامب الیش ہاسم مدنا ہے ما ورد 
۱ ام وا سے نل در فا کناب فا با کی یبود 
جقواب :۔ اتف جار نل ز اه ہے جوداسط لت کے لئے سے اص ناب ذاع لے 
مي ركام فور جاور یر كم اہ ان مب فائل جا اج ہوا 


انا اص اص اص ات اض اص اصاخ ا اص ان ضا صا ارز 


۔ تلاو نع فیط اوق 


:24 95.5 ۵ 666 ج2 جو جع 33-4-48 چ 
اف ی ۳ 
موب ہے اک د كود سج می ںکردوٹوں مہ يمركلا رود سه 
واب :ےار هلا رون اول متا م شا فرع ہے اور بيبا تما منصوب ہے۔ 
سيل (7):ولا مزيده لتاكيد :يهال سح لفظ لاك بصصورتسوال وجوا بقن ے_ 
رل ازسوال سيل قر بيد لاحظافرراية 
بيد :سب خطرات نے تضرع را س تکردا مطل علق جم تكانا بده ديق ےد یب 
۱ کااورنتی اقترا نكا جنا جر فاغسلوا وجرهکم وايديكم الاب ےرت ارا شاق کے 
فرضیت تیب الوضوء کے ات رلا لكا احنا فک طرف ے دی جاب ديا چا تا س ےک واو 
الا تھا ن تست کے ے مول ہے چنا نام یدوم روس واو نے فظ م تکافا ده دی 
ےک ہشیت میں دولول زیراو رکرو ریک يان پچ رین اشمال ہو کچ ہی لک رون اکش 
آتے ہیں با یی ز یرآ اد بعد یش گرو یرد با اور حر ٹل ز یدبا اور جب ای بل پ7 ف 
تشد موااورکہا جا هکم ہا ء ف ید وکرو ہاں تاضق اک ا تالا تل شدکی ی ہو 
ہا کن زیر اکآ تے ہیں اورشايك ای یکر کےمقد ماوموترا۔ 

کن يبال عط ف کے وقت دوچ یں ہیں ایک كدت دوسرکی یت جرک تد ہے 
اب یی ایک قاعدد ےک جب مقیدبلقیر نی فل موق ىوش فقناقيدك ہوتی انه مقير 
ےا اب یہاں “یی فت تی چم تك ,اورت فرد یکا ات ہو عالاککہ برتقاضا كلام کے 
خلاف سبل مھا الى فت اال داح دیف کے کر نے کے اوراحقالات ملا شی کے بطلان 
کے لے واوعاطقے کے ہے طوف ےےل لقتال نایک دک رکرو 1211111111 
میدس مول ےا یط رح سے اناف ست فردی کے دوا ىا ای ہاۓے۔ 


68-5 69 و وج وووووووووو 


زار كركف ايضار فيه 


و 5 5 2 18 219 :3 جو و و ووو TEL‏ 0:15 وج و و ہ ود و وھ ا کا 22 6 و توق 
اناقل :۔ اب اس متام مب ل مقر نے اع كي مل ازمتطوف وبحرا ماطف ا اف 
( ون وضابط.كموافق )دبال لاي جا ا ےک تسل متام میس نی موجودموحالاكل. يهان 
ييل لفط بر ہے كات مغامر کے لے مقي جل افوا سکی وجہ سے لاف کال ناج 
نہ ہوا رات مغا ر کے لے ہ کت جمد ول ت یکی جانا س ےکی ان ی کے رات 
چلاۓ جوک مقار یس مغضوب عليهم وضالین ے۔ 

جاب :يق کہ یہاں هرات مغائرة سک لے ہے اور کی بکا تفاضا بجی ےکن 
انات ماج کے س تھی وخ نكمتن بت خا بست ہوم ے۴ تم ںکہ ای مفائلہز 11 
ی طور پر کا اق دی بوك اک ا أ ليست بل اش نز بال نتن موك مي ارامت 
لاسي اوراس ب چلا س کرو ہیں ضالل خضو ب میس ہیں جب ای جو قز مل ہنی با 
و باکر ل"السغضوب عليهم ولا الضالی نبا يا سوریس کہ غی رش اقات 
ئن مت انی می ب استمال ہوا چاو ج کین نیکست مدنا ےا می 
نات فا ئرج میں کن زی کہ وک او رلا ای کاب راز وا آل از لوف لا نا ہوا۔ 
ترا دتم يم کرت ےک غر سکن شی مول ہے نے ا کی ولي لكيه تا 
صاحب ال ی ہیں۔ 

ید سل انم دیب تیا حظ موت شوک مراف ومضاف ار کیب میں 
ج جز مضاف ال کے ف بل میس اور مو وہ چزمضاف مقر مکی مرک وجہ یہ جك جب 
مضا ف ای خودمضاف قد ہوکنا ےا ضاف تم ل کے ضاف قرم ہو کے * 
بای ضابط سيقت ی ا کان برشل ضار ب کرک ل میں لقن شل ضارب ١‏ 
زيد اانا بترا لت ماف ضار ب مضاف ال او مفعول ضار ب لہ از یړ ضاف الي 


4214 © 2 15 :17 :11 95 17 15 :17 17:15 2 37 12 5 :3 15 نت 


اغلا رن خرش رخاوف : 


پش 000001101131 
ےکی تراک م جرک اور دی مضاف ات ال کہ انا زید لا ضار بک ال 
یس قماانا لاضارب زیل كيل زیراو ہار نے وال مول )بال ز یرقم مكنا ہے و طابر 
سے جب يبال مضاف ومضاف ال تیش نف رب مولمضاف الیکا سوال بيد ل منت يبان 
رض :افيس اب دوہشا لی بك کے ايك اورعال لک اس بات کے وليل لضم 
ریک با فیک أفى کے ل ےبھی سل وق شبات مفائر 7 کے ونش ضروربشق 
و کن موك جنا كلا معرب میس ایا تس انان بیدا شی رضارب مها لا جر ور یہ 
خیب راف سے اورضارب مضاف الہ اورز يدا معو ل ضار ب ضا يط ساب کے ما تحت ز يراك 
تفز مكل الضاف هونا 3 نہ وتا اس تاره رب ٹیس ال مثا نک جواز ملا سحأو بان 
دک بان خی رع لا نافیہ ہے اور بي اضافت مع لا اضافت کے ے اورال اضاف تک 
افقبا كال بل يرث لا ے اورعبار گی کہ لول سگرن يدا لا ضارب نے ل ط رع لا 
ضارب وا یکلام یل زيرك قاط ربا کی يداك تقزم امد سے جب ہے 
بات نابت ہوئ یک يق س کی ستتمل ہوا ےا يك خابت »اک نات مفائز ۃ کے وق کی 
مان ضردرہوگا۔ 

سيل( 4):-وقرئ وغير الضالین سے والشلا تک دور ی ایک ٹر :شاذ ہکا زب 
اک چا ےک ریک لا أ جا بنا ہے یہا لش قراء نے ولا ای نکی ماس غير 
الضالان بڑھاے شل ایک بی ہے فی نان میں فرق ے۔ 

مہ( ۸):۔ والصددال ضا لن کے مادو اشنا كامح لغوى واصطلا ىكابيان ے۔ 
وی عدو كن الط ربق السو جرکاسع یگ مکر نے کابھی ہے اس می تم ےک اعدو عدا 
لديا خط ہواکی بناء اشت رب شل ضا لکا کن رن د کردا نک سکب مکردہ راو 
ران و ردان وتا چ چنا ردو ہرک ضالا برق مم نر بن سکیا س ےک اد تھا لی نے 


5189 8 818 415 85 2812 3219 651 5 5 © 


اغ وي حضاوو 


۵ 002492۵۵۵ !8 9:15 21 0 ذا جذا وا ا ا ذا 19 © جنا ا 12 15 15 5 15 9 92 5282286۵ ہوجو 
“مي لكشتل میس سرک ردان اي ی داولا اصطلارح شعت می طلا لكل ملك +( لايخ 
افراد بل السو صادق شآ ے )کے درج يل ہے ال کے بہت سے درجات وافراد ل لاف 
الى ےکف رت ككوضلا لكباحاجا سے معلوم مو اكرال می طلال کے ادل درج ( خلا ف الى )اور 
على درج( كفر) نس بذ افر ن اک ط ر کرو کچھ یی ملك کے درج رل ل - 
ميلم (8):-# ويل ےم صا وا مخضوب وضا ل کیان اف ری میس قل اخ رواو کے جاو 
يهال سے تام عصراق او ىكابيان موك او ربت رل جی کہ مار قرو ول 
واو عاطفہ کے اکم ےلو اس وفنت اکا ن بر ہوگا مطلب یہ دک کہ ایک 
مصداقی یز ر چا ے اوردوسرے مصداقی کے تلن یبا ےڈ يبان سے دوس مصدا لک 
مان مدا اودرو :مص داق اول ہے س ےک خضو مہم وضا ل نكا مص راق يميج لکفار كوك ناش 
مل كفري نسي ئيس جنار ان یرمس فض بکالخظ تما مکذار بد ردب ہے 
ولكن من شرج بالكفر صدرا فعلیهم غضب من الله (الایۃ پ۱۳)اورای‌طرافظ 
ضلا ل اناري إولاكيا سان الذین كفروا وصةوا عن سبيل الله قدضلوا 
ضلالابعيدا (پ٦)‏ 
را ال اور یی قول بمو رفس ری کی سے نيحد بمث مر متلوم سب هكم 
ریت ع رک بن عاتم یکر مھ سے روا کر تے ہی سک خضو ٹہ مک مص را يبود ثيل اور 


شا نکامصراق نصاری ہیں۔ 
رش :يبور کا خر اور نسار ی کی کارت پرا تضاف بصشت جر ہکا کیا فام ني زأضب 
وطلالت میں فر لكيه ١‏ 


چوا پ: نحضب و لال میں فرق ہے ےکفحضب میں خت فقتصان ے او رانا رد ےاور 
فلا لک مکردو راد اس میں همع رتش س کر سکن س کہ وہ جات ھی ت ہو 


ا © 2 9 3 ۵ 5 1 3 5 13 8 


زغ لن وي ركني التضاري 


يہ بج و ٭وسرئیسوی‪وےستھ: وھ 
بيذ اوه راس بمو كي رد شی بصفا مت کی ہے سکب سا واگ اور 
رایسب پاش کے باو :وق چتانچرانہول باع زیر ابن الله ان الله فقير 
ونحن اغنياء يد الله مغلو لة نل نيا بم السلا بيرت سك وخ رہ نز قران یر سه ان 
كعداوت شر يد ہکا زک رکا > لتجدنّ اشد الناس عداوة اللذين آمنوا اليهود 
(پ٦)‏ الع وج هک بنا م وولو عم ت قضب سے متصف بو - اوراى کے وار كك گے اور 
سار یکی ےت کین نکی ناف مانیاں ود ےگ در قل نز شا مزر تاک یں 
موق ال ما حر یں علیہ السلا م سے ہیں ورد وفیره اس دج سفت طلا ل ے 
متصف ہو ع چنا نے اس مصدا كيلك قرآن شل یا دق ہیں يبود کے تل ارشاد سے 
فمنهم من لعنه اللہ وغضب عليه (پ۷)اورنصاری کے تات ارشارے قد ضلوا من 
قبل واضلو کثیرا (پ٦)‏ 

مصراقٌ ا لق نشی نزن الوجاجمت تن با تھی ار چ درج تاو يل مس ےکن زی 
وجا ہت تج رہ وگی۔ 

سوال :ابتار قرش مو اک وہ ول ادرو رایت روات موم کے مت بل کی ےسود) موی 
یراس 

واب :ته نے فتطمصدا یکو یا ن فر ایا ےلکن حمر یں فر ایا ادرو چ حدر ا ے 
گی می تكراب تس رامصداق جھ بیان ہوگا ال یت تقر ان می رکآ بات سق بول سے اس 
لئ ارحص ماد یت تو تقایل ترش بالقراان لا ز مآ تلا بھی تاعکر ہے کے موا دوس 
مسا ی با نکیا ہا کا ےاس صد ات شال ٹکوامام راز شیر رل بان مایا ہے دہ 
یر جک شخضوب سے مراوضیقہ ہیں اور ضا لکامصداقی جها كنع الاعتقاديات ول وج ہے > 


لس سس 5 48 5 بل 3 83 


ار بت فان 


وی وھ 26ھ - 189 58:18:18 92ت ٭ 9 19 2.2 1215 :21518 219 2-2 فا ذلا ا کا انا اص شع 


کمک مات می الڈدتھا لی نے جن ٹج با ہیں ایک شع لے ہم اوردو طق مخقوب وضالان کے 
إل جو1 دی مک مص داق بوک ال ے دو نزو ںکا با مج ہونا رو ری ہے ا لش حرفت 
اتتادا نظ یکی مولى چا رن لبھی ہونا چا ہے لك جاح لقو ان ریہ وامحملیة 
مول اوران می ںکائل ہوں محرفۃ احکامات اعنقاد ‏ کی لزا نقصوومولى ے اور پاق محرفت 
اک ما تج ع مح دک بو ہیں اعمال ے۔ان کے مھا بے میں دو لبق عبان ےو مرف 
اعننقاد یا تھی نکی اورت نے حرف اعتقاد يا تل کر لین ان پل کیا تذ اب جس نے 
اتتقاديات کے عام ہونے کے پاوجودقو شل ورا بکیا اور اما لکوت کیا وولو مصراق ٠‏ 
مفضو بم ے ادرال يرثت وكيد ے کین یم کے پا ولس ےمد یٹ تمرف میں سے 
و یا ى مرة وو ل للها ین مرة اوک قال علي السلام اور چو باک حرف اعنقادیات سے ہی 
کر حاورا نحکوحاصل کا وص وا ضال بخ- ۱ 

خلاصہ یک ہشن انان »وس (1)عالم دعا ی دومع کیال تو اکیا ےق وحتقلی کو 
اور یکی ۱ 
(۴) عا لم ےک وه خضوب کول« وخ البوى سب( !)او رجا ل ضال ےا یک تیر ران 
بيد ساق قات ل عر متلق ر اإوغضب الله عليه ( پ )اور جائ لك نالاعتقاديات 
کے بارے شل فربایافماذا بعد الحق الا الضلال (پ٦)‏ 

اہ :اکا م ظر تقد کے سات تح کیا یوت وہ مطاب للوا ع ہوتے ہیں اور 
احکا بات مل يكو كبا یریگ د دض دق ارہد کے ہیں۔ 

مسل( *۱):-وقری ولا الضالین ےر 8 شماذ ہکا ذکر سے۔ 

ہف ء 3 الن چچنارفرامتفظرات کے زديك ے جوک مق سا الین 22ص اتے ہیں 
چنا انتا ان دوم ہوتا ہیی عده جک یجن شراک کے ات روط ہے( پا اکن دده 


سس 135 55 63 35 95 3 


09770 ۱ 


ہبی 0س 27 990000000 
رو( )ورا اکن بر ہو( ۳) رکش ایک ہو۔اس وق م ہے سج دان 
سکن تھے جاتے ہیں اور دوس ا مکی رحد هک كور يا لش الا عل كول ایک ش رط نہ 
١‏ #واب ہاں ضا ن یس شر اال غ يات جاتے ہی تو دونو ں سان بذ ے جاتے ایض 
ہر لھا كان سے بہت باس نو ۰7و 
ولا الض لین پڑھاعا اک ا نکا خیا لچ كيدل ار مکالتقا نوي حاجنا بير ان یر 
می ےقل اتَحَاجُوْتي - ےس شس سر یر ےم ہت 


1 
1 رق 


آمیشن سم ال ال هو اس استجب وعن ابن عبّاس قال سَأْلْتُ سول | 
رل کلب لدت و لک راید می کت رھ ےھر ھا 


وم لصوو ری یت N‏ موی رو نوج یدع ند می ہو ںیسح A‏ الال جه یسر ta o‏ بد ده تعن a aE‏ وت ردب یم حبص تمسح مع ۰ 


کے ہے ےہ بي علي | کہ گان 


سے یب یی وہ بت مد نے تسه سو نیہ 


ینت تسه هه ی ی مو کپ بے و ےی ے سے ا سے سم مم حم 


لياو اش کت زیت اب وق ضرف فان 


تست ام یی و سر اس یں e‏ سح ری و مات بت رت سے سد هه 


یر من الف مده موه وفوا کے سا كا مرب می ولد ہے (اف ند ل ) شائ رک قل ے | 


زع ممت مم بت وت ہج 


وَيَرْحَمُ الله عبدا فال آمیّنا وَقَالَ امین قَرَادَ الله ما یا با 


دسج mm‏ سس« 


ويرم م الله الخ اورجوا لی وها سك بعر شن کاٹ تال اس را ے یں (اورنتصور یں )نا۶ رکا 
ولج اڪ امین َرَادَ الله الخ ال تھا فو لف او س کاشتفال ماد ےدرمیان داز اد هگ ے 


لیس من الْقْرّآن وففا. ء لکن يسن ختم | سور به لقَوله عَلَيْه الصّلاة 


ورن با تھا ق رآ نکا رگم کک رور ناتاو کر مسنون ےکی ںآ پ عل رال اسلا مک ۱ 
وَالسّلام "عَلْمَنِىَ جبریل آمیْنَ عند فراغی من قراء 
| شاد کہ نك ججرنل نے تر عت فاق سے مار ہو نے کے بع آي نك تيم وی اور يكبا کہ ۱ 


اص 3532735355 5 53 55 5 15 5 2 


ة لد وَقَالَ ان 


زغ وڼ تن اهاري a‏ 


8 1 1 یی پیٹ و شر یی نش نٹ ات 


سح ید مب ساد عم اح سس ید mam‏ دی دع ما لے سس سد مر جح اد دع ہی سک س سس نے لے ہے سے ا ت هه لس سے سے ت نمت ت سے 


_ سس مرح ی سد سی سس مو هکس مس سوه و وک اس سر و عو ھا 


اسهم ماب سا اس سا تمس شا ہن ےت کی ہے سای ا مگ ده هت ی همست مہ ےت شاد دمم اه لت پک تی مت 


007 "۳ك 0/] 


۱ ےت بر 2 خ- تر تی 


ema ao شر رش رر‎ a r تج‎ 1+ geme جع یس مرس سید و او عع ع‎ a امع‎ E E a يده‎ n سج‎ E EEE 


انه لا یله والمنهوز ر نه يفيه کما روَا عبانم 


زا اماک بت کلم تهج شخ 
۳1 وَالْمَامُوْمُ ؤمَن مَعَهُ میا مَعَه قله عَلَيْهِ الصَّلاةٌ السام رداق ادا قال الْإمَام ۲ 


ا تج rma taa eaten a hun o aaa‏ وه وا ue‏ سس 


0 ۰ 9 سل جباام| 
لا الضالین قفا آمین نالا نك تفل آمين فَمَنْ وَاقَق تام 


سی رر رر شش e‏ شش a‏ 


مه کید ام ال 


مین الا ِكة عفر ما تلم من ذنبه وعن آبی هُرَيْرَةَ ری الله عن 
ت ا کے ۔اورحطرت ابو ہریرہ رل اللہ عند ست هروک سه كم | 


أن سول الله صلی الله عله وَسلُم قال لأ ألا خبرک بِسُوْرَةٍ 
ضور االو وواللا م حطر ت الي مب رش ارپا کے ایی سور کے بارے می ردروں ۱ 


57 739 :3 سن 5 3 7 9353 


تاو ي رف لا وي 


2 
5 نول فی الَورَاة نجل وَالْرّآن مها قال قلث بلي اط 


رت کے ے7 کت 7یپ 


ت ع ع ع اا س بي يت اح مم تا ل لاحت ع لاع لتم مات اح س ل ا ص مک که شش شس شش یں شش مرس سس ل ا 


لاست e a‏ ی 


2 وا رور رد 


اوه عن ان قاس عي لت قال EEE‏ 


| بعلا کیا کی - او ریت ان عم پاش ی انا سے مر وی س ےکور ہی انا تضمور چ کک 
ak‏ 


e age شش‎ rae e a at r a me r ع ع ل‎ aran aa ہش رجش‎ n an n an a i aa سس یتست تسس‎ n ama n n n oa an 


])007080828:71 


!امک ایک فرش آیا اور ال کہا دونوروں کے سام خش ہو جا جے جد آ پکو عطا کے گے | 


0 ی ی یو و ست ع حم یت ع ت ت کت ت اح ت حي ت ت ص یت م ا ات سس ت ت | 


رت ی لک ايخ لاب رايم وة انرڈ أن ترا | 
ا E‏ یکو لاہ یں کے ادف اب وی یر کل خر آیات ول بعس لآ پیش 


س۰ت أَعْطِيْتهُ ہے ات نت 


اعد سد سد مد سد سد سب سرت دع ید لہ دس سس سس سس سے سس بت ها[ 


ا ہہ سر تر :018 ذه 


قفاوت كركف الرضاري 2 
وه هو ده هو و ۵۵9۵22972222 6 دود جلا 1 و و و هو و و و 0 ےہ 6ےہ کے 3 99ج 
انرا مصنف :1 ین سسسورة ابقر وتک اف ین لسارمل سات سا لكا لزاه . 
عبات اراس - 

(۱)امین اسم للفعل بل نک یوی شین ے_ 

(۲)الذي هو استحب ے مبنی على الفت ح کک عو یجن ے_ 

(۳)و ی ے لالتقاء سا کنی تک ال کن یا معرب مو ےک شان ے۔ 

(۴)وجاء مد الفه سے ولیس من القراركل] من فی تتاف کیان ے۔ ۱ 
(۵)ولیس من القران ے يقوله الامام تک اس کے واف فى الق 1 ET‏ 
227 

(1)يقو لہ الاهام عن ابی ہریرہکک آ می نک غیت راء ۃ کیان ک ابش 
جاۓ یا مرا او ریت تقر ء کی این لون مد ده 

(ے )عن ابی هریر هت رل سور فا ےنیل ذکر کے ہیں 

مل (1:01 مین قحل میں یط یقن جك تقد يرتم کات بک بلاتشد ید 
ہے بیاسا الا فعال ٹس سح اام لمع اقب ہے 00 

دش ال لب | سض کیو ں كت وت اوت یوک یی اجب میں سے 
فو اس لفق آ ین نے ایک اہی "نب دااا کی جو مقت رن باع الا زم الگا غ سے اور ی 
تیف کی ہے لہا سوام لکی چا سے فطل یکبس اعتراض ام اسماء 
افعال پا 

#واپ :1 پ ورف ا ال کہ کے ہیں فقا ام الل سكل اسع ةكرام 
کے لے وضو 2 مونا رو ری ے اور براسماء افیا ل موضور] | با موضورع 


3 1 95 55325 5535 5553555 9:5 


اظ وي كرك ايضار 


هی سب 


للا لفط ہو تے ہیں چنا جر نکی مع لفط اجب کے لے ہے اوردق فت كب کے ہین 
یوت افوا لک کر دا یں اور ا شال تن ہیں اوراساءاقمال کے اوژان واشكال ان افیا لكل 
گردافول اور اشا لوں ےک تال امش کور پرا نکنام ركع ا گیا ہے اء انیا لک اہیے 
اسماء جوم وضو ع لطا فعال ہیں پرا الا زم الگا شد ير وه افیا ل م وضو لوطا لل کر تے ہیں ہک 
ذو اس افعائل ولال یکر سجن - ۱ 
مہ( ۴):۔الیدی ہو استجب مس نون کیان ے۔ 
ین" استسجب لک دول +درفواست بوي على الص ایا “ٹیم ے 
بعد درخواست استهاب سے این فى تا تیر کے نے روات تی یک یک حر این ععباس ری 
اعد ر ہے بكري سن یک کیک سے ا کاس در یاف کیا فو انہوں ےآ نکاصنی 
افعل اى اللهم افعل فعل الاستجابة ثرا 
ميل( ۳)تومینی على الفتح :يهال ےآ ننک مدرب دس تچ 
ضائط س ےکا ا ءافعال جب مشا ین الا ل کے مول وود ہو تے ہی سن یرل 
بھی اچ کی ام حواضرمعلوم بايذ ایی ہو اب اکن يا الحركت رركت 
یش ےکوی كنت مول پا ہل غور ے معلوم و س کدنا مش جوتق اج ہے ہیں ان 
کے ادا تا سا امن برداشم تی كي ہا تا الہ تمصحرب مل التقا le‏ ا نک برداش تکیاجاتاے 
ملا عالت وقف می خی ارم دغیرہ چنا چا نكو على اپ حت ہیں دفر بستكم 
معرب میں عالت وقف عالق مون ہے جوک بعد جس ال ہو ہا > با اوق طور پاتقاء 
ات كول رایس مول اور کی عالت دقف دائم رہ ہو لهذا ال النقاء 
الین دوا یکو برداش تن يا .ایرآ ین می دوس الکن بل دوصرے سان نو کو 
اكنال رکھا جا ۓےگا رک با ان اب مرک کی مو مم نے دیک اک یہلا اکن با 


22 2282 282688288 55: 53 5 5 55 


ارز ری بت دكذر برضاري 
مینست سس یت 


18374 :17 :2 17 2 :89 15 :9 10 191 1 15 12 18 125 15 35 95 38 15 1 15 45 9 32 و 5928 ود 


لك تفاضا ےک میرے مااع رک کت خفيف ہ کیل ا كارا لأ ىوراوريا نوی وو 
كر سس كلق سے اب اکر اد یکس رہ یس نے فو الى ارپ کات کی فو لی ارا رات 
از مآ ےگا اور یٹنیس ای رع مابعد من یھی کی كول لج نکسرے تت یل 
ہیں ارت یتآ لسغل الى لاک زاب تین 
راک امک | اس 
سل( ۳):وجاء مد الفه وقصرها ے يبال ےآ هن لیفیت تیان 
اس میں دوط رپ نکی روت ہی ںآ من پالم( تشر )دزن فا ل امین( ی 
O ۱‏ 2ں دونوں کے اسنشمہاداشیھارشعراء سے میں چنا انآ مین کے تخلق تون 
كشع رسب گنل کی حبت میں فرق »هک دجست يتاب تفت "و کول کے شور 
سے ا سكاو الا لکو بیت الڈش ریف س کی اورک اک کح ان کے فلا فک وچ کرد کرک اللهم 
ار حنی من لیلی وحبها ( تن میرااللہ لش کی عبت سے راح دے )يكن امام العفاق 
جناب کون صا حب نے اتا کر بكس دما کم اللهم مغ بل ی وقربها 
ID)‏ جه پرا تسا نکر ) اوراال کے اشعا ر شس ے ايل شري سه 
ى يارب لاتسلبدى حبهاابدا وير حوالله عبدا قسال آمينا 
الا ہب مکی لبد ےھ بھی سلب زر اجره ین کےا تخالل ال يررك فرءاسة ہیں 
تا تفر مان ےکا مطلب ہے س ےک وع )وقول فر بے ہیں اش ی نکی ہے 
بذ ابادى تھالی ری دع اک شر وليت سے نواز یں کے ۔ اور یا چم کا مطلب ےس کہ یه 
مرم جل جوکیں نے دعاك ہے اس جانا نگ یآ ین کیا ال پاش رک ےکا یلاس 
نے مر سے اعات فی اھاب الد ھا کی ہے کے اس شح کے صرح خاش می لآ من بالمد ہے بروزن 
فا مل اوا ی شع ر ايل لض تک تا رمو 


سس سم 55 سی 535 35 


أ2 وي كركف ضار 


ا ےی وص 7 و 
اوردوس | شع رات اض کاس کہا نے بل سے ات امان شل د ےے 4و انف 
لب کے نواس نے ده شا 
تباعد عنى فطحل اذدعوته ' امین فزاد الله مابينا بعدا 
وس 7 ےک لكوبلايا قاس نے دور افتيارك سے( شن بر تش لآب ) 
تیال ول ٹر کر رت تم 
یھی جب مرس سات وہ اق بے مروف سے لآ یا سك امامت میس ر کے اوشف 
وال تیش کل اك انان کے اروت وبتكت کر 9 0 رم لدعا اگرتاہوں 
کاش تھا ہجار ےدرمیان اس بی یکواورزیا ده كيل ادن ہکہددیا اق بقورع کے لک 
گو ک بيرك دعا تول گی ہوئی ات يبال این روزن یل ہے۔ 
شم پل کے کم ہے انت انل بلدا ین پا 20 نے 
جاب :-1 نین بال هم عرش کے لاط ے اش کے ون فلاف لبذ ادرستالال- 
٠ ٠‏ فائکدوزردا یت تو دونوں ںان وچ ہونے یس اختلاف انف جات ان 
ار شتآ جن موز شرب فک س كدكر يلت پصلی ونال لق تلد ادوس ری از 
17 یگ فا لكا وز نلف ت عرب میں ہا کلک ے اون كت ہی سکرام روای تآ م نکی 
اشن ہلا داز ے۔(ا ل اکتا فکوحاش كناف لعلا ماود يرعلا رودل ليا ) ۱ 
مت( :نویس من القران ےآ مین سول قران ہے یاد ہے ےک تین >- 
اس ےق حفرت تاش صاح بك ملق یہ چک ہآ مین جزوق رآ نکش ے ہلان ) 
کین سلف صا ین کے مصاحب سابل ب بل بل چا وتران مولى توب 
ف الصاف ضرور و او رارف مصاحف میں وس رم الفا سم ہوئی بھی جار 


3 سس ہنس 


أ وي كركف اليضاري 


مہرد بہجس چیپوھٹوو‪ وو BES OP‏ 8 
اس کے علق فس ری کنیس ےک هسو بسدعة كربا وجودجز و القران نہد ے اتشان 
ہو نے ال پگ اتا س ےک بدا فا الک بسن مسنون ےج سط رع دوم کی شور کے 
غيل چندالفاط ہیں جوک با جو وعد مو ب القران وعدم جز وکن الق ران ہونے کے سنون 
یس چیسےسورۃ قاد کے بحر ی كبزايا سورة کل کے بح د ایند ا ينا ومورب لها نكبنا وغيره نی 
کرای کاارشادے علّمنى جبریل آمين عند فراغى من قرءة الفاتحه 

ج ب تضور اقلم لو تام امیت کے لئ بیط ی سنو انیز یک کم عله نے 
رماي لم انه کا لختم على الکتا با نل ررح خط يرم نكا سل ست خط امو ن فا مور 
انی ہا تا سا طررح سورة فا تج کے بحآ ین کی سے ما موا نف دید والھ مان ہو جال 
ال میں ححضر تع كم الشدد ج ہکا اش بھی س ےکرانہوں نے فرما اک امیسن حاتم 
رب العالمين ختم به دَعَاءَ عَبده ۔ 
مل( ) :قو له الاهام ےآ نک يفيت قراءة كابياان ےک ایا رای جا ۔اور 
کی تقر كن س کاو پڑ ھے کیت خر 3 کے پار سے می و تفاس كمسب ہیں 
ری تت زی کی او راما بھی (احنا فك شبوررواييت می سب روات ہے 
بھی ہےکہ نہ من کی تق راہ جس اختلاف ہے احزاف کے زديل غاز می لآ ۲ن مر 
پڑ ترا شوخ صلوة هري یں ججرا ہنی جاو سهد 
رمل شوائح: :- وال بن من داق یس ردایت ے انه اذا قرء ولا الضالين - 
قال امین وَرَفْعَ بها صوته 
ويل احناف: :-قوله تعالی ادعو ربكم تضرعا و خفیه ( الاب یپ ۸)اورآ رق 
دعاء ہے يرا يمت الل ےآ ہت بذ ےکا قاض اکر ری ے۔ 


ا لد مب ا ا ا یں 


غ وي كركف الاو 


© و و هو ھڑچ و هو و و و و و و و و هو و و و ده دون ود دو ود مووووو و ود 3 
وییل(۴): حر عبراب بر ل ند او رح باس دک دواعت ے 
جوا ب وا :# حطرت دنرگ روای تک جاب ہے کہ ونیم امت کے لے تھا 
کر بعد للجم مت سب ہآ پ ۳ کی کوک رار کل ربتکا مامت ۱ 
کے لئے کرام کار رکھت رن نکر ےکر ووی ہیں دی کیم امت کے 
چنا وضو یں ین وفعر ا عضاء کے دو کو ر ككرنا امت کے س کرو سيان نکر 
مک سے ایک روا عابنت ای امت کے لے ے ویره وغيره اذ اصلاقة مر 
انج ۱ 
فضیلت؟ مین کے تاق حد یت ہ نیک ریپ نےف اذا قال الا مسسام 
ولاالضالین قولوا آمين فان الملائكة تقول آمين فمن وافق تامينه تامین 
الملائكة غفر له ماتقدم من ذنبه يهال وان یل موافقت ے یا موفقنت فى الوت مرا 


ےی ماقتو شون مراد ہے_ 
سیل( ے )عن ابی ھری رة يبال ےآ کک علامہ زر ىالل اتا حگکرتے ہو ے ورو 
ات کیال :كرك ہیں۔ 


قا ئده:#سورة ات هت تاش صاح بك وک رکرو اماد یٹ خلا ق بلح يبل دوحدنگیں 
إن اورتیسری ےتا جلال الد ین مہو سے رم فر ال جک بعد یٹ٣‏ وضو ہے 
عد ییث(۱):- عن ابی هريره رضى الله عنه ان رسول الله نا قال لابی ابن 
كعب الا اخبرک بسورة لم تنزل فى التواراةوالانجيل والقران مثلها قلت بلى 
يا رسول الله قال فاتحة الكتاب انهاالسبع المثانى والقرآن العظيم الذى اوتيته 
عراييث( ۲):-وعن ابن عباس قال بينا نحن عند رسول الله تسه اذ اناه ملک 


سی ید سر سیر ریت 


لفاو بک رکف نار e‏ 
وج وت 6202 822۵۵ 26٤6298928٤9٤288‏ 5 5553133 3325 ےہ 81393 6 
فقال البشربنورین اوتیتهسمالم يوئتهمانبيّ قبلک فاتحة الكتاب و تخزاتیم 

سورة البقرة لن تقرء حرفا منها الا اعطیته 

٠‏ حدییث(۳):-عن حذیفه ابن یمان ان النبی صلی الله عليه وسلم قال ان القوم 
يبعث الله علیهم العذاب حتما مقضياً فيقراء صبی من صبیانهم فی الکتاب 
اللخمد لله رب العالمین فیسمع الله تعالی فیرفع عنهم بذالک العذاب 

اربعین سنه 

سوال :تمض صاحب نے فضائ سور کو1 خی ںکیوں زک کیا ہے ا لان ابا سور وش زکر 
کرنا جا ہے تھا اور بچی طروت ہو ررر نكا ہے فضائل سور کو مو کر کے جو رمف ری نک 


غلا فآردیا۔ 
جواب :# ہچوک ہقاضی صاح کف بیاو ینغ مکشاف ے ناخو ےد اعلامہ زر ىكل 
چا اکر تے »وس ای اکیا۔ 


با زقاعرہ ےک موصو ف مقرم اورعش ت مخ بو ے _سورة قات وسوی ہز امقدم ری اور 
ای سو رو صفمات کے درج ل ہی لبذ اال لمو خر ذک رکیا- 

فائده :جد یٹ سل موضورع ہو ےکی 56 وچ -لوك جب فران ود یٹ سے اعراش 
کرنے کش بز رول نے نيبت مج بيب وتغي بك جنداحاديث ع كس جا لوك 
ران دعد بی تک طرف جور كيل _افبول نے فک نیت کسام مایت کی ان 
نل دوسرہےلوکوں نے نر فاسد سے احکابا کیا اعادبیث بش کر فی شرو كر ديل ۔ ای 
با تکومٹانے اور ب کر نے کے ےرات مو رشن نے قبولییی احادبی تک معيارقا کیا اور 
بہت بذ اشيم الا ناء ر جال “ایا دکیا۔اسی وج سے اختلاف نض عفرا کچ ہیں 


63 55 5 5 513 ہی سس سی نت 


وف وي كركف اهاري 


۲ لے ےت e‏ ا 22 a‏ 


كما مات کی اد کا حكرنان جام ہے نات وتر يا تک احاد یی کاو عکرنانا جا 
أثث سکیوکلہ ان يب احكاءاتكا دارو ارال اور ی وج س ےک رشن کیت ہی فشكل کے 
پارے میس احاد یت یھی قبو لک لیا ہا ك يكن بن حطر ات ف مات ہی کی مکی 
اعاد یکاک ومن كذب على متعمدا لیب مقعدہ من النارواو كما قال) کا 


صدا مبھا جا کاب 
اھت رائل:.۔ ج ب تسری حد یٹم ضوع بق اذى صا حب بج بہت بد يضرف اقل 
کیو ںکیاے؟ 


بقواپ:- کے دو ی ار ہے فی نک - طت کے اف راخ کلف ہوتے 
0 و رت اور 
روا یہ بج کرت ہی ںی نخس ری كاري ہوتا ‏ الى مس کے سلمل رتست رل 
عق میں نم اويح مو ہا عیف مول ا ومع کر دیا جائۓ۔ ترات دي ناكام کرای 
لتق دک کت وم سے بک کر تے ہیں اوح تکوستلومکر هی وچ سكعلا مه 
جلال الد بین سيق رمة لقرعي تيب بہت بڈے ہو ر حر کی ابی في رجلایشن یں 
اماد یی ثرت و عا كع ہے بل اورک یک نف رین شاا صا حب ورا لمعاف د صاح ی كرورم 
نے الق رد احادييث موضو كوك دیا ہے۔ تارذ اي یف اتنام 
اعاد يش سکس ےکا کیا سب جنا نیف ری نكا خضرت دائود علیہ السلام کے وال 
تک ناکر وْخِئَ فی يک ما الله مُبَديْهِ وَتَحْشَى اللاس وَاللَهُأُحَقٌ 
آن تخشاه رترت نیشب کے یش والا واق اناا سورة مس 7 وات رک اسب موضورع 
إل الى دج بی س کہا نک نظ ر یی اکتا ماماد بی کش کر دیا اس اح دشک تن کت 
مگ کے قود فيص لک ریس گے۔ چنا نچ اتال نے ہرز مان مس ا ريا كولكل لدف در 


وڈ وأ 2و 3 5 18 3 5 32 4 :ذا 596-488 


غرلا وي نت راخ ار 


58 ار 5 8 55 5 49 50 20 2 2 ت2 :59 0 0 40 © 22 8 6.2.2 زا کا 0 58ھ 80 44 د 
پا رکھا جک فیط الفا ظط حك جلا ر ےے ليث هيا وی ے۔ 
سم کی ہا تک ایک واقحہ:۔حخرت امام بخاری رق اٹ دکادا ڈو شود ےکک ج 
عورش ا كيان وبال د ہے وا لحرن نے امام بخارى کے ضط کا مان لين کے لئے 
ول دمیو ںکومقمر دک یاکہ ہرایک امام تفارک کے سان ذل میں بذك اورا نکی سند یں غا 
مل کرد ے کی دبي كالول راو کی دوسری حد ب١ٹ‏ می لی دور کا یں اور چنا میں میں 
سے ایک وی سند كلوط کے ساتجد حدبیٹ بذ هنا اام با رک ب رحد یٹ کے جاب لک رد یج 
الم (دى لا كلم ) لوک مان ہوم کر رارقا من با کی کا اما ہک 
رح ہین جب دس7 ری ان سواحاد ی تاسیسات يذه كف امام بخارق نے يسك 
د یکو لای او رک ارذ نے جود اعادبیث با ہیں وه طط رع ہیں اسل سند رد بی ٹک ہے 
سا ى ری ان سواحاد ی کر انا رتاو ط کے سا بھی مداد سن کے سا کی سنا دیا 
لن کت ران ہوک رر و گے اورعلق درک اور بو هكيا- 
استاذ يم مولا نا مورا صاحب کےفرمانے کے مطا بن امام ار یکو يارج 1تون 

صد یٹ بحست د کے یا - 

"اوقت ای طررح انور ےک کیب کرت الح رشن فت الفا کے 
نے سے بی حریت یب ضوع ہو ےکومعلو مک لے ہیں چنا نيال نے ایک مدت ضوع 
نیپ گی ا لک ار با پیا می ین سعي د قطان رم بد رع رام رل کے 
سا سي سکیا اوران ام ناش شش سے ریگ نے الفاظ کے حك مو دی جواب دک ہی ان 
الفاظا ےمد ٹک شو رش تران مور کی اوران سک الد بی توا 

لم اب 


و وه هو س یی یب ریت